Urdu-Page-372

ਆਸਾ ਮਹਲਾ ੫ ॥
aasaa mehlaa 5.
Raag Aasaa, Fifth Guru:
 آسا مہلا   
 ਪਰਦੇਸੁ ਝਾਗਿ ਸਉਦੇ ਕਉ ਆਇਆ ॥
pardays jhaag sa-uday ka-o aa-i-aa.
O’ my true Guru, after wandering through the
 countless births, I have come to meditate on Naam
 
ਹੇ ਸ਼ਾਹਚੌਰਾਸੀ ਲੱਖ ਜੂਨਾਂ ਵਾਲਾ ਓਪਰਾ ਦੇਸ ਬੜੀਆਂ ਔਖਿਆਈਆਂ ਨਾਲ ਲੰਘ ਕੇ ਮੈਂ ਤੇਰੇ ਦਰ ਤੇ ਨਾਮ ਦਾ ਸੌਦਾ ਕਰਨ ਆਇਆ ਹਾਂ l
 پردیسُ جھاگِ سئُدے کءُ آئِیا  
پردیس ۔ بیگانے ملکوں ۔ جھاگ۔ بھٹکتے بھٹکتے ۔ سودا۔ سا۔ سامان ۔ 
اے سچے مرشد بیگانے ملکوں میں بھٹکتے بھٹکتے یہ سودے کی خریداری کے لئے آئے ہیں

 ਵਸਤੁ ਅਨੂਪ ਸੁਣੀ ਲਾਭਾਇਆ ॥
vasat anoop sunee laabhaa-i-aa.
I have heard that you have the wealth of Naam which is of incomparable beauty and is very profitable.
 
ਮੈਂ ਸੁਣਿਆ ਹੈ ਕਿ ਨਾਮ ਵਸਤੁ ਬੜੀ ਸੁੰਦਰ ਹੈ ਤੇ ਲਾਭ ਦੇਣ ਵਾਲੀ ਹੈ
 ۄستُ انوُپ سُنھیِ لابھائِیا  
دست انوپ۔ انوکھی ایشا۔ لابھایئیا ۔ لالچ پیدا ہوا
 انہوں نے نرالی انوکھی اشیا سن کر للچا گئے۔ 

 ਗੁਣ ਰਾਸਿ ਬੰਨ੍ਹ੍ਹਿ ਪਲੈ ਆਨੀ ॥
gun raas baneh palai aanee.
I have gathered and brought with me the capital of virtues.
 
ਮੈਂ ਗੁਣਾਂ ਦਾ ਸਰਮਾਇਆ ਪੱਲੇ ਬੰਨ੍ਹ ਕੇ ਲਿਆਂਦਾ ਹੈ,
 گُنھ راسِ بنّن٘ہ٘ہِ پلےَ آنیِ  
گن اؤصاف ۔ راس۔ پونجی ۔ پلے ۔ دامن لپستا نیلا لچ ہوا(1) 
اور اؤصاف کا سرمایہ دامن میں لیکر ائے ہیں

 ਦੇਖਿ ਰਤਨੁ ਇਹੁ ਮਨੁ ਲਪਟਾਨੀ ॥੧॥
daykh ratan ih man laptaanee. ||1||
Beholding the jewel like Name of God, this mind of mine is fascinated.
 
ਪ੍ਰਭੂ ਦਾ ਨਾਮਰਤਨ ਵੇਖ ਕੇ ਮੇਰਾ ਇਹ ਮਨ (ਇਸ ਨੂੰ ਖਰੀਦਣ ਵਾਸਤੇਰੀਝ ਪਿਆ ਹੈ l
 دیکھِ رتنُ اِہُ منُ لپٹانیِ  
اور ان بیش قیمت سودے کو دیکھ کر دل میں شوق اور لالچ پیدا ہو گیا۔ 

 ਸਾਹ ਵਾਪਾਰੀ ਦੁਆਰੈ ਆਏ ॥
saah vaapaaree du-aarai aa-ay.
O’ my Guru, the devotees have come to your door.
 
ਹੇ ਸ਼ਾਹਹੇ ਸਤਿਗੁਰੂਤੇਰੇ ਦਰ ਤੇ (ਨਾਮ ਦਾ ਵਣਜ ਕਰਨ ਵਾਲੇਜੀਵਵਪਾਰੀ ਆਏ ਹਨ
 ساہ ۄاپاریِ دُیارےَ آۓ  
ساہ ۔ سیٹھ۔ شاہوکار ۔ مراد مرشد ۔ واپاری ۔ سودا گیر ۔ دوآرے در پر۔ وکھر۔ 
اے سچے مرشد تو الہٰی نام کے سودے کا شاہوکار ہے ۔ اس الہٰی نام کے سودا کے سوداگر تیرے در پر خریداری کے لئے ہیں

 ਵਖਰੁ ਕਾਢਹੁ ਸਉਦਾ ਕਰਾਏ ॥੧॥ ਰਹਾਉ ॥
vakhar kaadhahu sa-udaa karaa-ay. ||1|| rahaa-o.
Please make them aware of the wealth of the Naam and teach the way to acquire it. ||1||Pause||
 (ਤੂੰ ਆਪਣੇ ਖ਼ਜ਼ਾਨੇ ਵਿਚੋਂਨਾਮ ਦਾ ਸੌਦਾ ਕੱਢ ਕੇ ਇਹਨਾਂ ਨੂੰ ਸੌਦਾ ਕਰਨ ਦੀ ਜਾਚ ਸਿਖਾ  ਰਹਾਉ 
 ۄکھرُ کاڈھہُ سئُدا کراۓ  رہاءُ  
سودا۔ ساز سامان (1) رہاؤ 
 اپنا سودا نکالواور سودا کراؤ رہاؤ۔

 ਸਾਹਿ ਪਠਾਇਆ ਸਾਹੈ ਪਾਸਿ ॥
saahi pathaa-i-aa saahai paas.
The sovereign God has sent me to the Guru.
 
ਪਰਮਾਤਮਾਸ਼ਾਹ ਨੇ ਮੈਨੂੰ ਗੁਰੂ ਦੇ ਪਾਸ ਭੇਜਿਆ,
 ساہِ پٹھائِیا ساہےَ پاسِ  
پٹھایئیا ۔ بھیجا ۔ 
خداوند کریم جو تمام خزانوں کا مالک اور شاہوکار ہے مرشد شاہوکار کے پاس بھیجتا ہے ۔ ۔

 ਅਮੋਲ ਰਤਨ ਅਮੋਲਾ ਰਾਸਿ ॥
amol ratan amolaa raas.
From the Guru I have attained the priceless wealth of jewel like Naam.
 
ਗੁਰੂ ਦੇ ਦਰ ਤੋਂ ਮੈਨੂੰ ਉਹ ਰਤਨਉਹ ਸਰਮਾਇਆ ਮਿਲ ਪਿਆ ਹੈਜਿਸ ਦੇ ਬਰਾਬਰ ਦੀ ਕੀਮਤ ਦਾ ਦੁਨੀਆ ਵਿਚ ਕੋਈ ਪਦਾਰਥ ਨਹੀਂ ਹੈ
 امول رتن امولا راسِ  
امول رتن۔ بیش قیمت ۔ راس پونجی ۔ سرمایہ ۔ 
سودا بھی بیش قیمت ہے اور اس کے لئے سرمایہ بھی بیش قیمت چاہیے

 ਵਿਸਟੁ ਸੁਭਾਈ ਪਾਇਆ ਮੀਤ ॥
visat subhaa-ee paa-i-aa meet.
By God’s grace, I found a loving friend (Guru),
(ਪਰਮਾਤਮਾ ਦੀ ਮੇਹਰ ਨਾਲਮੈਨੂੰ ਪਿਆਰਭਰੇ ਹਿਰਦੇ ਵਾਲਾ ਵਿਚੋਲਾ ਮਿੱਤਰ ਮਿਲ ਪਿਆ ਹੈ,
 ۄِسٹُ سُبھائیِ پائِیا میِت  
وتٹ سبھائی ۔ نیک خیال وکیل ۔ وچولا درمیانی ۔ میت ۔ دوست ۔ 
اب درمیانی وکیل و چولا مل گیا ہے جو ایک بہترین دوست ہے

 ਸਉਦਾ ਮਿਲਿਆ ਨਿਹਚਲ ਚੀਤ ॥੨॥
sa-udaa mili-aa nihchal cheet. ||2||
from whom I obtained the wealth of Naam, and my mind stopped wandering after the worldly wealth. ||2||
 
ਉਸ ਪਾਸੋਂ ਪਰਮਾਤਮਾ ਦੇ ਨਾਮ ਦਾ ਸੌਦਾ ਲੱਭਾ ਹੈ ਤੇ ਮੇਰਾ ਮਨ ਦੁਨੀਆ ਦੇ ਪਦਾਰਥਾਂ ਵਲ ਡੋਲਣੋਂ ਹਟ ਗਿਆ ਹੈ 
 سئُدا مِلِیا نِہچل چیِت  
نہچل ۔ چیت ۔ مستقل مزاجی سے۔(2) 
 
جس سے مستقل ماجی سے سودا مل گیا ہے

 ਭਉ ਨਹੀ ਤਸਕਰ ਪਉਣ ਨ ਪਾਨੀ ॥
bha-o nahee taskar pa-un na paanee.
Neither the thieves can steal this wealth, nor the wind or water can damage it.
ਇਸ ਰਤਨ ਨੂੰ ਨਾਹ ਚੋਰ ਚੁਰਾ ਸਕਦੇ ਹਨਨਾਹ ਝੱਖੜ ਉਡਾ ਸਕਦੇ ਹਨਨਾਹ ਪਾਣੀ ਡੋਬ ਸਕਦਾ ਹੈ) 
 بھءُ نہیِ تسکر پئُنھ ن پانیِ  
تسکر ۔ چور۔ بھؤ۔ خوف
جسے نہ چور کا خطرہ ہے نہ ہوا اور پانی کا ۔

 ਸਹਜਿ ਵਿਹਾਝੀ ਸਹਜਿ ਲੈ ਜਾਨੀ ॥
sahj vihaajee sahj lai jaanee.
I have intuitively obtained this wealth of Naam from the Guru and intuitively I will take it with me (after death)
 
ਸਹਿਜੇ ਹੀ ਇਹ ਰਤਨ ਮੈਂ (ਗੁਰੂ ਪਾਸੋਂਖਰੀਦਿਆ ਹੈ,ਅਤੇ ਸਹਿਜੇ ਹੀ ਇਹ ਰਤਨ ਮੈਂ ਆਪਣੇ ਨਾਲ ਲੈ ਜਾਵਾਂਗਾ
 سہجِ ۄِہاجھیِ سہجِ لےَ جانیِ  
سہج و اجھی ۔ درست خریداری ۔ 
 روحانی سکون کی برکت سے خرید کیا ہے اور روحانی سکون ہی ساتھ جائے گا

 ਸਤ ਕੈ ਖਟਿਐ ਦੁਖੁ ਨਹੀ ਪਾਇਆ ॥
 sat kai khati-ai dukh nahee paa-i-aa.
 I have not endured any pain or suffering because I earned this wealth of Naam through honest means.
 
ਈਮਾਨਦਾਰੀ ਨਾਲ ਖੱਟਣ ਕਰਕੇ ਇਹ ਰਤਨ ਹਾਸਲ ਕਰਨ ਵਿਚ ਮੈਨੂੰ ਕੋਈ ਦੁੱਖ ਨਹੀਂ ਸਹਾਰਨਾ ਪਿਆ
 ست کےَ کھٹِئےَ دُکھُ نہیِ پائِیا  
ست کے کھٹیئے ۔ سچے منافع سے ۔ (3)
سچے اور سچائی کیا ہوا منافع عذاب نہیں دیتا اور

 ਸਹੀ ਸਲਾਮਤਿ ਘਰਿ ਲੈ ਆਇਆ ॥੩॥
sahee salaamat ghar lai aa-i-aa. ||3||
I have safely enshrined this priceless wealth of Naam in my heart.||3||
 ਤੇ ਇਹ ਨਾਮਸੌਦਾ ਮੈਂ ਸਹੀ ਸਲਾਮਤਿ ਸਾਂਭ ਕੇ ਆਪਣੇ ਹਿਰਦੇਘਰ ਵਿਚ ਲੈ ਆਂਦਾ ਹੈ 
 سہیِ سلامتِ گھرِ لےَ آئِیا  
مکمل طور پر صحیح سلامت دل میں بسالیا ہے

 ਮਿਲਿਆ ਲਾਹਾ ਭਏ ਅਨੰਦ ॥
mili-aa laahaa bha-ay anand.
I have received the profit of Naam and my mind is in bliss.
 
(ਹੇ ਪ੍ਰਭੂਤੇਰੀ ਮੇਹਰ ਨਾਲ ਮੈਨੂੰ ਤੇਰੇ ਨਾਮ ਦਾਲਾਭ ਮਿਲਿਆ ਹੈ ਤੇ ਮੇਰੇ ਅੰਦਰ ਆਨੰਦ ਪੈਦਾ ਹੋ ਗਿਆ ਹੈ
 مِلِیا لاہا بھۓ اننّد  
لاہا۔ لابھ منافع ۔ 
مکمل منافع کمایئیا ہے جس سے تسکین حاصل ہوا ہے

 ਧੰਨੁ ਸਾਹ ਪੂਰੇ ਬਖਸਿੰਦ ॥
Dhan saah pooray bakhsind.
O’ God, the bestower of perfect gifts, I sing Your praises.
 
ਹੇ ਪੂਰੀਆਂ ਬਖ਼ਸ਼ਸ਼ਾਂ ਕਰਨ ਵਾਲੇ ਸ਼ਾਹਪ੍ਰਭੂਮੈਂ ਤੈਨੂੰ ਹੀ ਸਲਾਹੁੰਦਾ ਹਾਂ
 دھنّنُ ساہ پوُرے بکھسِنّد  
 شاباش ہے اس کامل شاہوکار کو جو پورا سخی اور سخاوت کرنے والا ہے

 ਇਹੁ ਸਉਦਾ ਗੁਰਮੁਖਿ ਕਿਨੈ ਵਿਰਲੈ ਪਾਇਆ ॥
ih sa-udaa gurmukh kinai virlai paa-i-aa.
Only a rare person attains this wealth of Naam by following the Guru’s teachings.
 
ਹੇ ਭਾਈਕਿਸੇ ਵਿਰਲੇ ਭਾਗਾਂ ਵਾਲੇ ਨੇ ਗੁਰੂ ਦੀ ਸਰਨ ਪੈ ਕੇ (ਪ੍ਰਭੂ ਦੇ ਨਾਮ ਦਾਸੌਦਾ ਪ੍ਰਾਪਤ ਕੀਤਾ ਹੈ
 اِہُ سئُدا گُرمُکھِ کِنےَ ۄِرلےَ پائِیا  
گورمکھ ۔ مرشد کے وسیلے سے ۔ 
مرشد کے وسیلے سے یہ سودا کوئی ہی پاتا ہے

 ਸਹਲੀ ਖੇਪ ਨਾਨਕੁ ਲੈ ਆਇਆ ॥੪॥੬॥
sahlee khayp naanak lai aa-i-aa. ||4||6||
Nanak earned this wealth of Naam by following the divine word. ||4||6||
 
ਗੁਰੂ ਦੀ ਸਰਨ ਪੈ ਕੇ ਹੀ ਨਾਨਕ ਭੀ ਇਹ ਲਾਹੇਵੰਦਾ ਸੌਦਾ ਖੱਟ ਸਕਿਆ ਹੈ 
 سہلیِ کھیپ نانکُ لےَ آئِیا 
سہلی ۔ آسان کھیپ۔ سودا۔
 نانک نے بھی یہ سودا آسانی سے ہی لے آیئیا ہے

 ਆਸਾ ਮਹਲਾ ੫ ॥
aasaa mehlaa 5.
Raag Aasaa, Fifth Guru:
 آسا مہلا   
 ਗੁਨੁ ਅਵਗਨੁ ਮੇਰੋ ਕਛੁ ਨ ਬੀਚਾਰੋ ॥
gun avgun mayro kachh na beechaaro.
O’ my friend, God did not take into account any virtues or vices of mine.
(ਹੇ ਸਹੇਲੀਏਮੇਰੇ ਖਸਮ ਨੇਮੇਰਾ ਕੋਈ ਗੁਣ ਨਹੀਂ ਵਿਚਾਰਿਆ ਮੇਰਾ ਕੋਈ ਔਗੁਣ ਨਹੀਂ ਤੱਕਿਆ
 گُنُ اۄگنُ میرو کچھُ ن بیِچارو  
 خدا نے میرے نیک و بد اوصاف کا کچھ خیال نہیں کی

 ਨਹ ਦੇਖਿਓ ਰੂਪ ਰੰਗ ਸੀਗਾਰੋ ॥
nah daykhi-o roop rang seeNgaaro.
He did not pay any attention to my beauty, color or adornments.
 
ਉਸ ਨੇ ਮੇਰਾ ਰੂਪ ਨਹੀਂ ਵੇਖਿਆਰੰਗ ਨਹੀਂ ਵੇਖਿਆਸਿੰਗਾਰ ਨਹੀਂ ਵੇਖਿਆ,
 نہ دیکھِئو روُپ رنّگ سیِگارو  
ا نہ کسی قسم کی شکل وصورت اور سجاوٹ دیکھی 

 ਚਜ ਅਚਾਰ ਕਿਛੁ ਬਿਧਿ ਨਹੀ ਜਾਨੀ ॥
chaj achaar kichh biDh nahee jaanee.
I did not know anything about good manners and conduct.
 
ਮੈਂ ਕੋਈ ਸੁਚੱਜ ਨਹੀਂ ਸਾਂ ਸਿੱਖੀ ਹੋਈਮੈਂ ਉੱਚੇ ਆਚਰਨ ਦਾ ਕੋਈ ਢੰਗ ਨਹੀਂ ਸਾਂ ਜਾਣਦੀ
 چج اچار کِچھُ بِدھِ نہیِ جانیِ  
چج ۔ سلیقہ ۔ آچار۔ طرز زندگی ۔ اخلاق۔ بدھ۔ طریقہ ۔ روپ ۔ خوبصورت ۔ شکل و صورت ۔ 
نہ کسی سلیقے اور طریقے کا خیال کیا اور

 ਬਾਹ ਪਕਰਿ ਪ੍ਰਿਅ ਸੇਜੈ ਆਨੀ ॥੧॥
baah pakar pari-a sayjai aanee. ||1||
Even then, my Husband-God led me to His Union. ||1||
 
ਫਿਰ ਭੀ ਮੇਰੀ ਬਾਂਹ ਫੜ ਕੇ ਪਿਆਰੇ (ਪ੍ਰਭੂਪਤੀਨੇ ਮੈਨੂੰ ਆਪਣੀ ਸੇਜ ਉਤੇ ਲੈ ਆਂਦਾ 
 باہ پکرِ پ٘رِء سیجےَ آنیِ  
سجے ۔خوآبگاہ۔ 
 از خود دل میں بس گیا۔ (1)

 ਸੁਨਿਬੋ ਸਖੀ ਕੰਤਿ ਹਮਾਰੋ ਕੀਅਲੋ ਖਸਮਾਨਾ ॥
sunibo sakhee kant hamaaro kee-alo khasmaanaa.
Listen, O my companions, my Husband-God has taken care me.
ਹੇ (ਮੇਰੀਸਹੇਲੀਏਸੁਣ ਮੇਰੇ ਖਸਮਪ੍ਰਭੂ ਨੇ (ਮੇਰੀਸੰਭਾਲ ਕੀਤੀ ਹੈ,
 سُنِبو سکھیِ کنّتِ ہمارو کیِئلو کھسمانا  
(1)سنہوسکھی۔ اے ساتھی سنہو۔ کنت۔ خاوند۔ مالک۔ کیئلو ۔ کرؤ۔ خصمانہ۔ مالکانہ فرائض
اے میرے ساتھیؤ سنہو خداوند کریم نے اپنا مالکانہ فرض ادا کر کے کیاہے ۔

 ਕਰੁ ਮਸਤਕਿ ਧਾਰਿ ਰਾਖਿਓ ਕਰਿ ਅਪੁਨਾ ਕਿਆ ਜਾਨੈ ਇਹੁ ਲੋਕੁ ਅਜਾਨਾ ॥੧॥ ਰਹਾਉ ॥
kar mastak Dhaar raakhi-o kar apunaa ki-aa jaanai ih lok ajaanaa. ||1|| rahaa-o.
taking me into His refuge, He protected me as His own. What does this ignorant world know about this mystery? ||1||Pause||
 
ਮੇਰੇ ਮੱਥੇ ਉਤੇ ਆਪਣਾ ਹੱਥ ਰੱਖ ਕੇ ਉਸ ਨੇ ਮੈਨੂੰ ਆਪਣੀ ਜਾਣ ਕੇ ਮੇਰੀ ਰੱਖਿਆ ਕੀਤੀ ਹੈ ਪਰ ਇਹ ਮੂਰਖ ਜਗਤ ਇਸ ਭੇਤ ਨੂੰ ਕੀਹ ਸਮਝੇ ਰਹਾਉ  
 کرُ مستکِ دھارِ راکھِئو کرِ اپُنا کِیا جانےَ اِہُ لوکُ اجانا  رہاءُ  
کر ہاتھ۔ مستک ۔ پیشانی ۔ رکھیؤ کر اپنا اپنا تصور ۔ کرکے ۔ اجانا ۔ نادان۔ نامعقول۔ (1) رہاؤ۔ 
 
اور میری پیشانی پر دست شفقت رکھ کر اپنایئیا ہے ۔ یہ نامعقول لوگ کیا سمجھتےہیں۔(1) رہاؤ

 ਸੁਹਾਗੁ ਹਮਾਰੋ ਅਬ ਹੁਣਿ ਸੋਹਿਓ ॥
suhaag hamaaro ab hun sohi-o.
(O’ my friend) My union with God now looks beautiful.
 
(ਹੇ ਸਹੇਲੀਏ!) ਹੁਣ ਮੇਰਾ ਵਿਆਹੁਤਾ ਜੀਵਨਸੁੰਦਰ ਲੱਗਦਾ ਹੈ
 سُہاگُ ہمارو اب ہُنھِ سوہِئو  
سوہیؤ۔ اچھا لگتا ہے ۔
اب میری زندگی کو عروج حاصل ہوا۔ اور مجھے الہٰی ملاپ حاصل ہوا اور ۔

 ਕੰਤੁ ਮਿਲਿਓ ਮੇਰੋ ਸਭੁ ਦੁਖੁ ਜੋਹਿਓ ॥
kant mili-o mayro sabh dukh johi-o.
I am united with my Husband-God and He has diagnosed all my maladies.
 
ਮੇਰਾ ਪ੍ਰਭੂਪਤੀ ਮੈਨੂੰ ਮਿਲ ਪਿਆ ਹੈਉਸ ਨੇ ਮੇਰਾ ਸਾਰਾ ਰੋਗ ਗਹੁ ਨਾਲ ਤੱਕ ਲਿਆ ਹੈ
 کنّتُ مِلِئو میرو سبھُ دُکھُ جوہِئو  
جوہیؤ۔ اندازہ کیا 
 اس نے میرے تمام ہمہ قسم کے عذابوں (کو) کا غور سے اندازہ کیا

 ਆਂਗਨਿ ਮੇਰੈ ਸੋਭਾ ਚੰਦ ॥
aaNgan mayrai sobhaa chand.
I am enjoying such a delight, as if in my heart is shining the moon of glory.
 
ਮੇਰੇ (ਹਿਰਦੇ ਦੇਵੇਹੜੇ ਵਿਚ ਸੋਭਾ ਦਾ ਚੰਦ ਚੜ੍ਹ ਪਿਆ ਹੈ
 آگنِ میرےَ سوبھا چنّد  
۔ آنگن ۔صحن مراد ۔ دل ۔ 
 اور میرا دل شہرت سے جگمگا اُٹھا

 ਨਿਸਿ ਬਾਸੁਰ ਪ੍ਰਿਅ ਸੰਗਿ ਅਨੰਦ ॥੨॥
nis baasur pari-a sang anand. ||2||
Night and day, I am enjoying the bliss in the company of my Husband-God. ||2||
 
ਮੈਂ ਰਾਤ ਦਿਨ ਪਿਆਰੇ (ਪ੍ਰਭੂਪਤੀਨਾਲ ਆਨੰਦ ਮਾਣ ਰਹੀ ਹਾਂ  
 نِسِ باسُر پ٘رِء سنّگِ اننّد  
نس ۔ باصر۔ روز وشب ۔ دن رات۔ (2)
اب روز وشب خدا کے ساتھ پر سکون آرام پاتا ہوں۔ (2)

 ਬਸਤ੍ਰ ਹਮਾਰੇ ਰੰਗਿ ਚਲੂਲ ॥
bastar hamaaray rang chalool.
I feel so happy, as if my clothes are dyed in the deep crimson color of love.
 
ਮੇਰੇ (ਸਾਲੂ ਆਦਿਕਕੱਪੜੇਗੂੜ੍ਹੇ ਰੰਗ ਵਿਚ ਰੰਗੇ ਗਏ ਹਨ,
 بست٘ر ہمارے رنّگِ چلوُل  
چلول چوں لالہ ۔ سرخ لال ۔
اب مجھے شوخ سرخ کپڑے مل گئے ہیں

 ਸਗਲ ਆਭਰਣ ਸੋਭਾ ਕੰਠਿ ਫੂਲ ॥
sagal aabhran sobhaa kanth fool.
My virtues adorn me, as if I am wearing ornaments and garlands around my neck.
 
ਸਾਰੇ ਗਹਣੇ (ਮੇਰੇ ਸਰੀਰ ਉਤੇ ਫਬ ਰਹੇ ਹਨਫੁੱਲਾਂ ਦੇ ਹਾਰ ਮੇਰੇ ਗਲ ਵਿਚ ਸੋਭਾ ਦੇ ਰਹੇ ਹਨ
 سگل آبھرنھ سوبھا کنّٹھِ پھوُل  
سگل۔ سارے ۔ آبھرن۔ زیور ۔ سوبھا۔ اچھے لگتے ہیں۔ کنٹھ۔ گلے۔ 
 اور تمام زیور گلے پھولوں کے ہار سج دھج دے رہے ہیں۔

 ਪ੍ਰਿਅ ਪੇਖੀ ਦ੍ਰਿਸਟਿ ਪਾਏ ਸਗਲ ਨਿਧਾਨ ॥
pari-a paykhee darisat paa-ay sagal niDhaan.
When my beloved-God saw me lovingly, I felt as if I had obtained all treasures.
 
ਪਿਆਰੇ ਨੇ ਮੈਨੂੰ ਪਿਆਰ ਦੀ ਨਿਗਾਹ ਨਾਲ ਤੱਕਿਆ ਹੈ ਹੁਣਮਾਨੋ ਮੈਂ ਸਾਰੇ ਹੀ ਖ਼ਜ਼ਾਨੇ ਪ੍ਰਾਪਤ ਕਰ ਲਏ ਹਨ
 پ٘رِء پیکھیِ د٘رِسٹِ پاۓ سگل نِدھان  
پریہ۔ پیارے ۔ پیہکی۔ دیکھی۔ درشٹ۔ نگاہ کی ۔ نظر کی ۔ سگل ندھان۔ سارے خزانے 
 پیارے خدا کی نگاہ شفقت سے سارے خزانے مل گئے ہیں

 ਦੁਸਟ ਦੂਤ ਕੀ ਚੂਕੀ ਕਾਨਿ ॥੩॥
dusat doot kee chookee kaan. ||3||
Now gone is the threat of any evil vices or impulses. ||3||
 
ਹੁਣਹੇ ਸਹੇਲੀਏਕਮਾਦਿਕ ਭੈੜੇ ਵੈਰੀਆਂ ਦੀ ਧੌਂਸ (ਮੇਰੇ ਉੱਤੋਂਮੁੱਕ ਗਈ ਹੈ 
 دُسٹ دوُت کیِ چوُکیِ کانِ  
۔کان۔محتاجی ۔ (3)
اور دشمنوں اور بدیوں کی محتاجی ختم ہو گئی ہے ۔ (3)

 ਸਦ ਖੁਸੀਆ ਸਦਾ ਰੰਗ ਮਾਣੇ ॥
sad khusee-aa sadaa rang maanay.
I am always happy and I am constantly enjoying the eternal bliss.
ਮੈਨੂੰ ਹੁਣ ਸਦਾ ਖ਼ੁਸ਼ੀਆਂ ਹੀ ਖ਼ੁਸ਼ੀਆਂ ਹਨਮੈਂ ਹੁਣ ਸਦਾ ਆਤਮਕ ਆਨੰਦ ਮਾਣ ਰਹੀ ਹਾਂ
 سد کھُسیِیا سدا رنّگ مانھے  
 ہر قسم کی خوشیاں حاصل ہیں اور روحانی سکون اور الہٰی پریم میں محو ومجذوب ہو ں

 ਨਉ ਨਿਧਿ ਨਾਮੁ ਗ੍ਰਿਹ ਮਹਿ ਤ੍ਰਿਪਤਾਨੇ ॥
na-o niDh naam garih meh tariptaanay.
God’s Name like the nine treasures the world is enshrined in my heart, therefore, all my longing for Maya has ended.
 
ਜਗਤ ਦੇ ਨੌ ਖ਼ਜ਼ਾਨਿਆਂ ਵਰਗਾ ਨਾਮ ਮੇਰੇ ਹਿਰਦੇਘਰ ਵਿਚ  ਵੱਸਿਆ ਹੈਮੇਰੀ ਸਾਰੀ ਤ੍ਰਿਸਨਾ ਮੁੱਕ ਗਈ ਹੈ
 نءُ نِدھِ نامُ گ٘رِہ مہِ ت٘رِپتانے  
ندھ۔ سامان آسائش ۔ گریہہ۔ دل گھر۔ ترپتا نے۔ کسی قسم کی بھوک یا خواہش باقی نہ رہ ۔
 میرے دل میں دنیاوی نو خزانے نام سے دل تسکین پا رہا ہے ۔

 ਕਹੁ ਨਾਨਕ ਜਉ ਪਿਰਹਿ ਸੀਗਾਰੀ ॥
kaho naanak ja-o pireh seegaaree.
Nanak says, when a soul-bride is adorned by God with virtuous life conduct,
ਹੇ ਨਾਨਕ! (ਆਖ-) ਜਦੋਂ (ਕਿਸੇ ਜੀਵਇਸਤ੍ਰੀ ਨੂੰਪ੍ਰਭੂਪਤੀ ਨੇ ਸੁੰਦਰ ਜੀਵਨ ਵਾਲੀ ਬਣਾ ਦਿੱਤਾ,
 کہُ نانک جءُ پِرہِ سیِگاریِ  
سیر ہوا۔ 
اے نانک بتادے کہ الہٰی ساتھ سے انسانی زندگی

 ਥਿਰੁ ਸੋਹਾਗਨਿ ਸੰਗਿ ਭਤਾਰੀ ॥੪॥੭॥
thir sohaagan sang bhataaree. ||4||7||
then she lives eternally united with her Husband-God. ||4||7||
 ਤਾਂ ਉਹ ਪੱਕੇ ਤੌਰ ਤੇ ਪ੍ਰਭੂਪਤੀ ਦੇ ਚਰਨਾਂ ਵਿਚ ਵੱਸਦੀ ਹੈ
 تھِرُ سوہاگنِ سنّگِ بھتاریِ 
سنگ۔ ساتھ ۔ بھتاری ۔ خاوند۔ 
 خوبصورت اور مستقل مزاج ہو جاتی ہے

 ਆਸਾ ਮਹਲਾ ੫ ॥
aasaa mehlaa 5.
Raag Aasaa, Fifth Guru
 آسا مہلا   
 ਦਾਨੁ ਦੇਇ ਕਰਿ ਪੂਜਾ ਕਰਨਾ ॥
daan day-ay kar poojaa karnaa.
O’ my friends, those Brahmins whom the hosts worship and give donations,
 
(ਹੇ ਭਾਈਵੇਖੋ ਅਜੇਹੇ ਬ੍ਰਾਹਮਣਾਂ ਦਾ ਹਾਲਜਜਮਾਨ ਉਹਨਾਂ ਨੂੰ ਦਾਨ ਦੇ ਕੇ ਉਹਨਾਂ ਦੀ ਪੂਜਾਮਾਨਤਾ ਕਰਦੇ ਹਨ
 دانُ دےءِ کرِ پوُجا کرنا  
دان۔ بلا معاوضہ کسی کو کچھ دینا دان ہے ۔ پوجا۔ پرستش ۔ 
لوگ دان دیتے ہیں ان کی پرستش اور عزت افزائی کرتے ہیں۔

 ਲੈਤ ਦੇਤ ਉਨ੍ਹ੍ਹ ਮੂਕਰਿ ਪਰਨਾ ॥
 lait dayt unH mookar parnaa.
  even after receiving charity, they deny getting any donation.
 ਉਹ ਬ੍ਰਾਹਮਣ ਲੈਂਦੇ ਦੇਂਦੇ ਭੀ (ਸਭ ਕੁਝ ਹਾਸਲ ਕਰਦੇ ਹੋਏ ਭੀਸਦਾ ਮੁੱਕਰੇ ਰਹਿੰਦੇ ਹਨ l 
 لیَت دیت اُن٘ہ٘ہ موُکرِ پرنا  
موکر پرنا۔ فراموش کرنا۔ احسان ۔ 
 اور ان کا کوئی احساننہیں

 ਜਿਤੁ ਦਰਿ ਤੁਮ੍ਹ੍ਹ ਹੈ ਬ੍ਰਾਹਮਣ ਜਾਣਾ ॥
jit dar tumH hai baraahman jaanaa.
O Brahmin, remember that court of God where you have to ultimately go,
 
ਹੇ ਬ੍ਰਾਹਮਣ! (ਇਹ ਚੇਤਾ ਰੱਖਜਿਸ ਪ੍ਰਭੂਦਰ ਤੇ (ਆਖ਼ਿਰਤੂੰ ਪਹੁੰਚਣਾ ਹੈ,
 جِتُ درِ تُم٘ہ٘ہ ہےَ ب٘راہمنھ جانھا  
جس الہٰی در پر ۔
 اے براہمن جہاں بوقت آخرت تو نے جانا ہے

 ਤਿਤੁ ਦਰਿ ਤੂੰਹੀ ਹੈ ਪਛੁਤਾਣਾ ॥੧॥
tit dar tooNhee hai pachhutaanaa. ||1||
at that door, it would be you who would repent for your past misdeeds. ||1||
 
ਉਸ ਦਰ ਤੇ ਤੂੰ ਹੀ (ਆਪਣੀਆਂ ਇਹਨਾਂ ਕਰਤੂਤਾਂ ਦੇ ਕਾਰਨਪਛੁਤਾਵੇਂਗਾ 
 تِتُ درِ توُنّہیِ ہےَ پچھُتانھا  
تت ور۔ اسی در پر ۔(1)
 اس در پر تجھے پچھتانا پڑے گا (1)

 ਐਸੇ ਬ੍ਰਾਹਮਣ ਡੂਬੇ ਭਾਈ ॥
 aisay baraahman doobay bhaa-ee.
 
O’ my brother, deem such Brahmins as drowned in worldly attachments,
 ਹੇ ਭਾਈਇਹੋ ਜਿਹੇ ਬ੍ਰਾਹਮਣਾਂ ਨੂੰ (ਮਾਇਆ ਦੇ ਮੋਹ ਵਿਚਡੁੱਬੇ ਹੋਏ ਜਾਣੋ, 
 ایَسے ب٘راہمنھ ڈوُبے بھائیِ  
ایسے براہمن زندگی ضائع کر لیتے ہیں

 ਨਿਰਾਪਰਾਧ ਚਿਤਵਹਿ ਬੁਰਿਆਈ ॥੧॥ ਰਹਾਉ ॥
niraapraaDh chitvahi buri-aa-ee. ||1|| rahaa-o.
who keep thinking about causing harm even to the innocent people. ||1||Pause||
 
ਜੇਹੜੇ ਨਿਦੋਸੇ ਬੰਦਿਆਂ ਨੂੰ ਭੀ ਨੁਕਸਾਨ ਅਪੜਾਨ ਦੀਆਂ ਸੋਚਾਂ ਸੋਚਦੇ ਰਹਿੰਦੇ   ਰਹਾਉ 
 نِراپرادھ چِتۄہِ بُرِیائیِ  رہاءُ  
نراپرادھ ۔ بغیر قصور۔ چتویہہ۔ خیال کرتے ہیں (1) رہاؤ۔
 جو بے قصوروں کی برائی کرتے ہیں (1) رہاؤ۔

 ਅੰਤਰਿ ਲੋਭੁ ਫਿਰਹਿ ਹਲਕਾਏ ॥
antar lobh fireh halkaa-ay.
Within them is greed and they wander around like mad dogs.
 
ਉਨ੍ਹਾਂ ਦੇ ਅੰਦਰ ਲਾਲਚ ਹੈ ਅਤੇ ਉਹ ਹਲਕੇ ਕੁੱਤੇ ਦੀ ਤਰ੍ਹਾਂ ਭਟਕਦੇ ਹਨ
 انّترِ لوبھُ پھِرہِ ہلکاۓ  
ہلکائے ۔ ہلک 
اے بھائی دل میں لالچ ہے اور لالچ کے پیچھے دؤڑے پھرتے ہیں

 ਨਿੰਦਾ ਕਰਹਿ ਸਿਰਿ ਭਾਰੁ ਉਠਾਏ ॥
nindaa karahi sir bhaar uthaa-ay.
They slander others and carry loads of sin upon them.
 
ਉਨ੍ਹਾਂ ਦੇ ਅੰਦਰ ਲਾਲਚ ਹੈ ਅਤੇ ਉਹ ਹਲਕੇ ਕੁੱਤੇ ਦੀ ਤਰ੍ਹਾਂ ਭਟਕਦੇ ਹਨ
 نِنّدا کرہِ سِرِ بھارُ اُٹھاۓ  
 اور برائیاں اور بدگوئی کرکے اپنے ذمے گناہگاری کا بوجھ اُٹھاتے ہیں۔ 

 ਮਾਇਆ ਮੂਠਾ ਚੇਤੈ ਨਾਹੀ ॥
maa-i-aa moothaa chaytai naahee.
Captivated by greed for worldly riches, this Brahmin doesn’t remember God.
ਮਾਇਆ ਦੇ ਹੱਥੋਂ ਆਪਣੇ ਆਤਮਕ ਜੀਵਨ ਦੀ ਰਾਸਿ ਲੁਟਾ ਬੈਠਾ ਇਹ ਬ੍ਰਾਹਮਣ ਪਰਮਾਤਮਾ ਨੂੰ ਚੇਤੇ ਨਹੀਂ ਕਰਦਾ
 مائِیا موُٹھا چیتےَ ناہیِ  
ے مایئیا موٹھا ۔ دؤلت کا گرفتار ۔ چیتے ناہی ۔ خدا کو یاد نہیں کرتا (2)
اور دنیاوی دؤلت کے لالچ میں روحانی زندگی کا سرمایہ لٹا بیٹھے ہیں۔ اور خدا کو ایسا براہمن یاد نہیں کرتا ۔

 ਭਰਮੇ ਭੂਲਾ ਬਹੁਤੀ ਰਾਹੀ ॥੨॥
bharmay bhoolaa bahutee raahee. ||2||
Deluded by doubt, he wanders around on many paths. ||2||
 
ਮਾਇਆ ਦੀ ਭਟਕਣਾ ਦੇ ਕਾਰਨ ਕੁਰਾਹੇ ਪਿਆ ਹੋਇਆ ਬ੍ਰਾਹਮਣ ਕਈ ਪਾਸੀਂ ਖ਼ੁਆਰ ਹੁੰਦਾ ਫਿਰਦਾ ਹੈ 
 بھرمے بھوُلا بہُتیِ راہیِ  
اور دؤلت کے لالچ میں گمراہ ہوکر ذلیل وخوآر ہوتا ہے ۔ (2)

 ਬਾਹਰਿ ਭੇਖ ਕਰਹਿ ਘਨੇਰੇ ॥
baahar bhaykh karahi ghanayray.
Outwardly, these Brahmins wear various religious robes,
ਅਜੇਹੇ ਬ੍ਰਾਹਮਣ ਲੋਕਾਂ ਨੂੰ ਪਤਿਆਉਣ ਵਾਸਤੇਕਈ ਧਾਰਮਿਕ ਭੇਖ ਕਰਦੇ ਹਨ,
 باہرِ بھیکھ کرہِ گھنیرے  
بھیکھ۔ پاکھنڈ۔ 
ایسا براہمن بیرونی طور پر اپنے آپ کو مذہبی رہنما ۔ ظاہر کرنے کے لئے کئی طرح کے بھیس بناتا ہے

 ਅੰਤਰਿ ਬਿਖਿਆ ਉਤਰੀ ਘੇਰੇ ॥
antar bikhi-aa utree ghayray.
but their mind is captured by the Maya.
ਪਰ ਉਨ੍ਹਾਂ ਦੇ ਆਪਣੇ ਅੰਦਰ ਤਾਂ ਮਾਇਆ ਘੇਰ ਕੇ ਡੇਰਾ ਪਾਈ ਬੈਠੀ ਹੈ
 انّترِ بِکھِیا اُتریِ گھیرے  
انتر ۔دل میں۔ انتر۔ دل میں۔
 مگر دل میں دولت کی لالچ اور محبت نے گھیر ڈال رکھاہے

 ਅਵਰ ਉਪਦੇਸੈ ਆਪਿ ਨ ਬੂਝੈ ॥
avar updaysai aap na boojhai.
They teach others, but do not understand themselves about righteousness.
ਜੇਹੜਾ ਬ੍ਰਾਹਮਣ ਹੋਰਨਾਂ ਨੂੰ ਤਾਂ ਧਰਮ ਦਾ ਉਪਦੇਸ ਕਰਦਾ ਹੈਪਰ ਆਪ ਉਸ ਧਰਮ ਨੂੰ ਨਹੀਂ ਸਮਝਦਾ,
 اۄر اُپدیسےَ آپِ ن بوُجھےَ  
اور اُپدیسے ۔ دوسروں کو نصیحت کرتا ہے ۔ آپ نہ بوجھے ۔
 دوسروں کو نصیحتیں کرتا ہے مگر خود حققیت نہیں پہچانتا اپنے آپ کو سمجھ نہیں۔ 

 ਐਸਾ ਬ੍ਰਾਹਮਣੁ ਕਹੀ ਨ ਸੀਝੈ ॥੩॥
aisa baraahman kahee na seejhai. ||3||
Such a Brahmin can never succeed anywhere. ||3||
 
ਅਜੇਹਾ ਬ੍ਰਾਹਮਣ (ਲੋਕ ਪਰਲੋਕਕਿਤੇ ਭੀ ਕਾਮਯਾਬ ਨਹੀਂ ਹੁੰਦਾ 
 ایَسا ب٘راہمنھُ کہیِ ن سیِجھےَ  
سیبھے ۔ کامیاب نہیں ہوتا۔ 
ایسا براہمن کامیاب نہیں ہوگا۔ (3)

 ਮੂਰਖ ਬਾਮਣ ਪ੍ਰਭੂ ਸਮਾਲਿ ॥
moorakh baaman parabhoo samaal.
O foolish Brahmin, meditate upon God.
 
ਹੇ ਮੂਰਖ ਬ੍ਰਾਹਮਣਪਰਮਾਤਮਾ ਨੂੰ ਯਾਦ ਕਰਿਆ ਕਰ.
 موُرکھ بامنھ پ٘ربھوُ سمالِ  
پربھ ۔ سمال خدال کو یاد کر۔ 
اے نادان برہمن خدا ویاد کر

 ਦੇਖਤ ਸੁਨਤ ਤੇਰੈ ਹੈ ਨਾਲਿ ॥
daykhat sunat tayrai hai naal.
God always watches and hears you, and is always with you .
 
ਪਰਮਾਤਮਾ (ਤੇਰੇ ਸਾਰੇ ਕੰਮਵੇਖਦਾ (ਤੇਰੀਆਂ ਸਾਰੀਆਂ ਗੱਲਾਂਸੁਣਦਾ (ਸਦਾਤੇਰੇ ਨਾਲ ਰਹਿੰਦਾ ਹੈ
 دیکھت سُنت تیرےَ ہےَ نالِ  
وہ تجھے دیکھتا ہے اور سنتا ہے اور تیرے ساتھ ہے 

 ਕਹੁ ਨਾਨਕ ਜੇ ਹੋਵੀ ਭਾਗੁ ॥
kaho naanak jay hovee bhaag.
O’ Nanak, tell to the Brahmin that if such be your destiny,
 
ਹੇ ਨਾਨਕ! (ਅਜੇਹੇ ਬ੍ਰਾਹਮਣ ਨੂੰ ਆਖ-) ਜੇ ਤੇਰੇ ਭਾਗ ਜਾਗਣ,
 کہُ نانک جے ہوۄیِ بھاگُ  
اے نانک بتا دے کہ اگرتیری قسمت میں ہے

 ਮਾਨੁ ਛੋਡਿ ਗੁਰ ਚਰਣੀ ਲਾਗੁ ॥੪॥੮॥
maan chhod gur charnee laag. ||4||8||
then renounce the ego of your social status and worldly wisdom and humbly seek the refuge of the Guru. ||4||8||
 
ਤਾਂ (ਆਪਣੀ ਉੱਚੀ ਜਾਤਿ ਤੇ ਵਿੱਦਵਤਾ ਦਾਮਾਣ ਛੱਡ ਕੇ ਗੁਰੂ ਦੀ ਸਰਨ ਪਉ 
 مانُ چھوڈِ گُر چرنھیِ لاگُ  
 تو وقار چھوڑ کرمرشد کے سایہ میں رہ