Urdu-Raw-Page-930

ਓਅੰਕਾਰਿਸਬਦਿਉਧਰੇ॥
o-ankaarsabaduDhray.
Onkaar, the all pervading God, saves the beings from the vices by attaching them to the Guru’s divine word.
ਜੀਵਗੁਰੂਦੇਸ਼ਬਦਵਿਚਜੁੜਕੇਉਸਸਰਬ-ਵਿਆਪਕਪਰਮਾਤਮਾਦੀਸਹੈਤਾਨਾਲਹੀਸੰਸਾਰਦੇਵਿਕਾਰਾਂਤੋਂਬਚਦੇਹਨ,
اوئنّکارِسبدِاُدھرے॥
اُدھرے ۔ کامیاب ہوئے ۔
اس اونکار کے کلام سے ہی انسان بدیوں اور برائیوں سے بچتا ہے

ਓਅੰਕਾਰਿਗੁਰਮੁਖਿਤਰੇ॥
o-ankaargurmukhtaray.
People swim across the worldly ocean of vices by remembering God through the Guru’s teachings .
ਗੁਰੂਦੇਦੱਸੇਰਾਹਉਤੇਤੁਰਕੇਪ੍ਰਭੂਨੂੰਸਿਮਰਕੇਜੀਵਸੰਸਾਰ-ਸਮੁੰਦਰਵਿਚੋਂਪਾਰਲੰਘਦੇਹਨ।
اوئنّکارِگُرمُکھِترے॥
گورمکھ ۔ مرید مرشد۔
اس اونم کے لفظ سے ہی مرید مرشد کامیابی پاتے ہیں۔

ਓਨਮਅਖਰਸੁਣਹੁਬੀਚਾਰੁ॥
onamakharsunhubeechaar.
O’ pundit, listen to the discourse on the word Om Namah.
(ਹੇਪਾਂਡੇ!ਉਸਮਹਾਨਹਸਤੀਦੀਬਾਬਤਭੀਗੱਲਸੁਣੋਜਿਸਦੇਵਾਸਤੇਤੁਸੀਲਫ਼ਜ਼ ‘ਓਅੰਨਮਹ’ ਲਿਖਦੇਹੋ।
اونماکھرسُنھہُبیِچارُ॥
اکھر ۔ لفظ ۔
اے انسانوں اوتم اکھر سنہو اور سوچو سمجھو خیال آرائی کرؤ ۔

ਓਨਮਅਖਰੁਤ੍ਰਿਭਵਣਸਾਰੁ॥੧॥
onamakhartaribhavansaar. ||1||
This Om Namah is the all pervading eternal God, the essence (creator) of the three worlds (universe). ||1||
ਇਹਲਫ਼ਜ਼ ‘ਓਅੰਨਮਹ’ ਉਸ (ਮਹਾਨਅਕਾਲਪੁਰਖ) ਵਾਸਤੇਹਨਜੋਸਾਰੀਸ੍ਰਿਸ਼ਟੀਦਾਕਰਤਾਹੈ॥੧॥
اونماکھرُت٘رِبھۄنھسارُ॥੧॥
تربھون۔ تینوں علاموں۔ سار۔ تت ۔ حقیقت ۔ بنیاد۔
لفظ اوم تینوں عالموں کی بنیاد ہے اور سارے عالم کا کارساز ہے اور یہ لفظ اُسی کے لئے محصوص ہے ۔

ਸੁਣਿਪਾਡੇਕਿਆਲਿਖਹੁਜੰਜਾਲਾ॥
sunpaadayki-aa likhahujanjaalaa.
Listen O’ pundit, why are you writing about the worldly entanglements?
ਹੇਪਾਂਡੇ! ਸੁਣ, ਤੂੰਸੰਸਾਰਕਝੰਬੇਲਿਆਂਵਾਲੀਲਿਖਾਈਕਿਉਂਲਿਖਦਾਹੈ।
سُنھِپاڈےکِیالِکھہُجنّجالا॥
جنجالا۔ الجھاؤ ۔تذبذب ۔
اے پانڈ ے سن یہ الجھاؤ ۔ جھمیلے اور مخمسے کیوں تحریر کر رہا ہے ۔

ਲਿਖੁਰਾਮਨਾਮਗੁਰਮੁਖਿਗੋਪਾਲਾ॥੧॥ਰਹਾਉ॥
likhraam naam gurmukhgopaalaa. ||1|| rahaa-o.
Instead, follow the Guru’s teachings and write only the Name of God who cherishes the universe. ||1||Pause||
ਗੁਰੂਦੇਸਨਮੁਖਹੋਕੇਸ੍ਰਿਸ਼ਟੀਦੇਮਾਲਕਪਰਮਾਤਮਾਦਾਨਾਮਲਿਖ॥੧॥ਰਹਾਉ॥
لِکھُرامنامگُرمُکھِگوپالا॥੧॥رہاءُ॥
مخصہ ۔ گوپال۔ مالک علام ۔
۔ الہٰی نام سچ حق و حقیقت تحریر کر جو مالک کل عالم ہے ۔

ਸਸੈਸਭੁਜਗੁਸਹਜਿਉਪਾਇਆਤੀਨਿਭਵਨਇਕਜੋਤੀ॥
sasaisabh jag sahjupaa-i-aa teen bhavan ikjotee.
Sassa (alphabet): God has intuitively created the entire universe; One divine light is pervading the three worlds (the entire creation).
ਪਰਮਾਤਮਾਨੇਕਿਸੇਉਚੇਰੇਉੱਦਮਤੋਂਬਿਨਾਹੀਇਹਸਾਰਾਜਗਤਪੈਦਾਕੀਤਾਹੈਉਸਦੀਜੋਤਿਸਾਰੇਜਗਤਵਿਚਪਸਰਰਹੀਹੈ।
سسےَسبھُجگُسہجِاُپائِیاتیِنِبھۄناِکجوتیِ॥
سہج ۔ قدرتی طور پر ۔ بلا جہدو ترود ۔ تین بھون ۔ تینوں عالموں میں۔ جوتی ۔ روشنی ۔ الہٰی نور۔
جس خدا وند کریم نے سارا عالم بغیر کسی خاص جہدو ترودسے پیدا کیا ہے اُسی کے نور سے تینوں عالموں میں سارا پھیلاؤ وسعتہے ۔

ਗੁਰਮੁਖਿਵਸਤੁਪਰਾਪਤਿਹੋਵੈਚੁਣਿਲੈਮਾਣਕਮੋਤੀ॥
gurmukhvasatparaapathovaichunlaimaanakmotee.
One who follows the Guru’s teachings, receives the wealth of Naam; yes, he amasses the wealth of the priceless gems-like Naam.
ਜੋਮਨੁੱਖਗੁਰੂਦੇਦੱਸੇਰਸਤੇਉਤੇਤੁਰਦਾਹੈਉਸਨੂੰਨਾਮ-ਪਦਾਰਥਮਿਲਜਾਂਦਾਹੈ, ਉਹਨਾਮਰੂਪਕੀਮਤੀਧਨਇਕੱਠਾਕਰਲੈਂਦਾਹੈ।
گُرمُکھِۄستُپراپتِہوۄےَچُنھِلےَمانھکموتیِ॥
گورمکھ ۔ مرید مرشد۔ دست ۔ اشیا۔ مراد الہٰی حقیقت۔ مانک موتی ۔ قیمتی ۔
یہ نور مرید مرشد کے وسیلے سے حاصل ہوتا ہے ۔ مراد جو مرید ہوکر مرشد کا بتائیا راستہ منتخب کرتا ہے اور اپناتا ہے وہی اس بیش قیمت الہٰی نام پاتا ہے ۔

ਸਮਝੈਸੂਝੈਪੜਿਪੜਿਬੂਝੈਅੰਤਿਨਿਰੰਤਰਿਸਾਚਾ॥
samjhaisoojhaiparhparhboojhaiantnirantarsaachaa.
If one understands, realizes and comprehends what he reads and studies, in the end he shall realize that the eternal God dwells deep within all.
ਬੰਦਾ, ਜਿਹੜਾਕੁੱਛਉਹਪੜ੍ਹਦਾਤੇਵਾਚਦਾਹੈ, ਜੇਕਰਉਸਨੂੰਜਾਣ।ਸੋਚਅਤੇਸਮਝਲਵੇ, ਤਦਉਹਓੜਕਨੂੰਅਨੁਭਵਕਰਲੈਂਦਾਹੈਕਿਸੱਚਾਸਾਈਂਸਾਰਿਆਂਦੇਅੰਦਰਹੈ।
سمجھےَسوُجھےَپڑِپڑِبوُجھےَانّتِنِرنّترِساچا॥
سوجہے ۔ سمجھے ۔ بوجھے ۔ سمجھے ۔ انت۔ آخر۔ نرنتر۔ لگاتار۔ چن ۔ انتخاب کر مراد نیکوںنیک عاداتو چال چلن ۔ اپنا ۔ ساچا۔ سچا۔ سچ و حقیقت۔
وہی سوچتا سمجھتا اور پڑھ پڑھ کر سمجھتا ہے کہ خدا کے بغیراس سارا علام نا پائیدار ہے ۔

ਗੁਰਮੁਖਿਦੇਖੈਸਾਚੁਸਮਾਲੇਬਿਨੁਸਾਚੇਜਗੁਕਾਚਾ॥੨॥
gurmukhdaykhaisaachsamaalay bin saachay jag kaachaa. ||2||
The Guru’s follower experiences the eternal God everywhere and enshrines Him in his heart; to him the entire world, except God, seems perishable. ||2||
ਗੁਰੂਦੇਰਾਹਤੇਤੁਰਨਵਾਲਾਮਨੁੱਖਉਸਸਦਾ-ਥਿਰਪਰਮਾਤਮਾਨੂੰਹੀ (ਹਰਥਾਂ) ਵੇਖਦਾਹੈਤੇਆਪਣੇਹਿਰਦੇਵਿਚਵਸਾਂਦਾਹੈ, ਪਰਮਾਤਮਾਤੋਂਛੁਟਬਾਕੀਸਾਰਾਜਗਤਉਸਨੂੰਨਾਸਵੰਤਦਿੱਸਦਾਹੈ॥੨॥
گُرمُکھِدیکھےَساچُسمالےبِنُساچےجگُکاچا॥੨॥
ساچ سمالے ۔ سچ و حقیقت اپنا دل میں بسا۔ بن ساچے ۔ بغیر سچے خدا کے ۔ جگ کاچا ۔ یہ عالم مٹ جانے ولاا ہے ۔
خدا ہی صدیوی ہے مرید مرشد دیدار کرتا ہے اور اس صدیوی حقیقت کو دل میں بساتا ہے ۔

ਧਧੈਧਰਮੁਧਰੇਧਰਮਾਪੁਰਿਗੁਣਕਾਰੀਮਨੁਧੀਰਾ॥
DhaDhaiDharam DharayDharmaapurgunkaaree man Dheeraa.
Dhadha: One who remains in the holy congregation and enshrines faith in his mind, his mind remains content and he imparts this virtue to others. ਜਿਹਡਾਜੀਵਧਰਮਪੁਰੀਵਿਚਰਹਿੰਦਾਹੈਅਤੇਧਰਮਨੂੰਆਪਣੇਅੰਦਰਟਿਕਾਂਦਾਹੈਉਸਦਾਆਪਣਾਮਨਟਿਕਿਆਰਹਿੰਦਾਹੈ, ਤੇਉਹਹੋਰਨਾਂਵਿਚਭੀਇਹਗੁਣਪੈਦਾਕਰਦਾਹੈ।
دھدھےَدھرمُدھرےدھرماپُرِگُنھکاریِمنُدھیِرا॥
دھرم دھرے ۔ فرض شناشی کی نصیحت کرتا ہے ۔ دھر ماپر ۔ فرض شناشی کی بستی میں مراد خدا رسیدہ فرض شناسوں کی صحبت و قربت میں۔ گن کاری ۔ اوصاف ساز۔ من دھیرا۔ دل کی تسلی ہوتی ہے ۔
جب جائے فرض شناسی میں فرض شناسی کی واعظ و نصیحت کی جائے تو اس اوصاف کرنے والے کے دل کو تسکین ملتا ہے

‘ਧਧੈਧੂਲਿਪੜੈਮੁਖਿਮਸਤਕਿਕੰਚਨਭਏਮਨੂਰਾ॥
DhaDhaiDhoolparhaimukhmastakkanchanbha-ay manoora.
Dhadha: One who follows the Guru’s teachings with such humility, like applying the dust of the Guru’s feet on his face and forehead, he becomes so virtuous as if a piece of rusted iron has become Gold.
ਜਿਸਮਨੁੱਖਦੇਮੂੰਹ-ਮੱਥੇਤੇਗੁਰੂਦੇਚਰਨਾਂਦੀਧੂੜਪਏ, ਉਹਨਕਾਰੇਸੜੇਹੋਏਲੋਹੇਤੋਂਸੋਨਾਬਣਜਾਂਦਾਹੈ।
دھدھےَدھوُلِپڑےَمُکھِمستکِکنّچنبھۓمنوُرا॥
مکھ چہرے ۔ مستک ۔ پیشانی ۔ کنچن ۔ سونا۔ منور۔ بوسیدہ لوہا۔
جس کے چہرے اور پیشانی پر ایسی واعظ کرنے والے کے پاوں کی دہول پڑتی ہے تو وہ بوسیدہ لوہا سے سونے بن جانے کے مترادف ایک بدکار بد چلن سے نیک اور با اوصاف شخص میں تبدیلی ہوجاتا ہے ۔

ਧਨੁਧਰਣੀਧਰੁਆਪਿਅਜੋਨੀਤੋਲਿਬੋਲਿਸਚੁਪੂਰਾ॥
DhanDharneeDharaapajoneetolbolsachpooraa.
Praiseworthy is God, the support of the universe, who is free of incarnations, His virtues are unmeasurable and His divine words are eternal and perfect.
ਧੰਨਹੈਉਹਧਰਤੀਦਾਸਹਾਰਾ, ਵਾਹਿਗੁਰੂ,ਜੋਅਜੋਨੀਹੈ;ਉਹਤੋਲਵਿਚਬੋਲਵਿਚਸੱਚਾਤੇਪੂਰਨਹੈ।
دھنُدھرنھیِدھرُآپِاجونیِتولِبولِسچُپوُرا॥
دھرنیدھر ۔ زمین کا سہاراخدا۔ اجوتی ۔ پیدائش سے مبرا۔ تول بول۔ وز و کلام۔ سچ پورا ۔ صدیوی کامل ۔
ا یسا مالک عالم آپ پیدائش سے مبر اور وز و کلام میں کامل اور صدیوی ہے

ਕਰਤੇਕੀਮਿਤਿਕਰਤਾਜਾਣੈਕੈਜਾਣੈਗੁਰੁਸੂਰਾ॥੩॥
kartaykeemitkartaajaanai kai jaanaigursooraa. ||3||
The Creator alone knows His own extent, or the brave Guru knows the extent of God’s virtues. ||3||
ਸਿਰਜਣਹਾਰਦੇਵਿਸਥਾਰਨੂੰਸਿਰਜਣਹਾਰਹੀਜਾਣਦਾਹੈ, ਜਾਂਜਾਣਦਾਹੈਸੂਰਬੀਰਗੁਰੂ।
کرتےکیِمِتِکرتاجانھےَکےَجانھےَگُرُسوُرا॥੩॥
کرتے ۔ کار ساز۔ مت ۔ مقدار ۔ کے جانے یا جانتا ہے ۔ گر سور ۔ بہادر مرشد
کارساز عالم کرتار کی قدر وقیمت خود کارساز کرتا رہی جانتا ہے ۔ یا بہادر سمجھتا ہے ۔

ਙਿਆਨੁਗਵਾਇਆਦੂਜਾਭਾਇਆਗਰਬਿਗਲੇਬਿਖੁਖਾਇਆ॥
nyi-aangavaa-i-aa doojaabhaa-i-aa garabgalaybikhkhaa-i-aa.
One who forsakes the Guru’s teachings and falls in love with things other than God, is consumed by ego, the poison leading to spiritual deterioration. ਜੋਮਨੁੱਖਸਤਿਗੁਰੂਦਾਉਪਦੇਸ਼ਵਿਸਾਰਦੇਂਦਾਹੈਤੇਕਿਸੇਹੋਰਜੀਵਨ-ਰਾਹਨੂੰਪਸੰਦਕਰਦਾਹੈ, ਉਹਅਹੰਕਾਰਵਿਚਨਿੱਘਰਜਾਂਦਾਹੈ, ਤੇਉਹ (ਆਤਮਕਮੌਤਦਾਮੂਲਅਹੰਕਾਰ-ਰੂਪ) ਜ਼ਹਿਰਖਾਂਦਾਹੈ।
گنِْیانُگۄائِیادوُجابھائِیاگربِگلےبِکھُکھائِیا॥
گیان ۔عالم ۔ سمجھ ۔ دوجا بھائیا۔ دوری محبت کیو جہ سے ۔ گر بھ گلے ۔ غرور اپنا کر ۔ وکھ کھائیا۔ پرائی یا بندی اپنائی ۔
جس نے حقیقت اور علم گنوا کر دوسروں سے کی محبت و غرور میں ملوث بدیوں ا و ر برئیوں میں ملوث رہا اور دل میں بساتا ہے ۔

ਗੁਰਰਸੁਗੀਤਬਾਦਨਹੀਭਾਵੈਸੁਣੀਐਗਹਿਰਗੰਭੀਰੁਗਵਾਇਆ॥
gurrasgeetbaadnaheebhaavaisunee-ai gahirgambheergavaa-i-aa.
The sublime hymns of the Guru are not pleasing to him, he does not like to hear them and gets separated from the unfathomable and profound God.
ਉਸਮਨੁੱਖਨੂੰ) ਸਤਿਗੁਰੂਦੀਬਾਣੀਦਾਆਨੰਦਤੇਗੁਰੂਦੇਬਚਨਸੁਣੇਨਹੀਂਭਾਉਂਦੇ।ਉਹਮਨੁੱਖਅਥਾਹਗੁਣਾਂਦੇਮਾਲਕਪਰਮਾਤਮਾਤੋਂਵਿਛੁੜਜਾਂਦਾਹੈ।
گُررسُگیِتبادنہیِبھاۄےَسُنھیِئےَگہِرگنّبھیِرُگۄائِیا॥
گر رس۔ لطف مرشد۔ گیت ۔ نغمے ۔ باد۔ فضول۔ باھوے ۔ سنیے ۔ چہاتا ۔ نہیں سننا ۔ گہر گنبھیرگوائیا۔ نہایت سنجیدہ ۔ کھوئیا
الہٰی مرشدی نغمے فضول سمجھتا ہے سننا نہیں چاہتا اور سنجیدگی اور گہری سوچ سمجھ گنوا لیتا ہے

ਗੁਰਿਸਚੁਕਹਿਆਅੰਮ੍ਰਿਤੁਲਹਿਆਮਨਿਤਨਿਸਾਚੁਸੁਖਾਇਆ॥
gursachkahi-aa amritlahi-aa man tan saachsukhaa-i-aa.
One who lovingly remembered God through the Guru’s teachings, received the ambrosial nectar of Naam, and God becomes pleasing to his mind and heart.
ਜਿਸਮਨੁੱਖਨੇਸਤਿਗੁਰੂਦੀਰਾਹੀਂਸਦਾ-ਥਿਰਪ੍ਰਭੂਨੂੰਸਿਮਰਿਆਹੈ, ਉਸਨੇਨਾਮ-ਅੰਮ੍ਰਿਤਹਾਸਲਕਰਲਿਆਹੈ, ਫਿਰਉਸਨੂੰਉਹਪਰਮਾਤਮਾਮਨਤਨਵਿਚਪਿਆਰਾਲੱਗਦਾਹੈ।
گُرِسچُکہِیاانّم٘رِتُلہِیامنِتنِساچُسُکھائِیا॥
گر سچ کہیا۔ مرشد نے سچھی نصیحت کی ۔ انمرت لہیا۔ جس سے آب حیات حاصل ہوا ۔ من تن ۔ دل و جان۔ ساچ سکھائیا۔ سچے صدیوی خدا سے محبت ہوئی ۔
جو مرشد کے وسیلے سے سچے خدا کی حمدوثناہ کرتا ہے ۔ وہ آبحیات مراد روحانی واخلاقی زندگی پاتا ہے ۔ دل و جان سے صدیوی سچے خدا سے محبت ہوجاتی ہے ۔

ਆਪੇਗੁਰਮੁਖਿਆਪੇਦੇਵੈਆਪੇਅੰਮ੍ਰਿਤੁਪੀਆਇਆ॥੪॥
aapaygurmukhaapaydayvaiaapayamrit pee-aa-i-aa. ||4||
God Himself unites one with the Guru, bestows the gift of meditation, and He Himself makes that person drink the nectar of Naam ||4||
ਉਹਆਪਹੀਗੁਰੂਦੀਸਰਨਪਾਕੇ (ਸਿਮਰਨਦੀਦਾਤਿ) ਦੇਂਦਾਹੈਤੇਆਪਹੀਨਾਮ-ਅੰਮ੍ਰਿਤਪਿਲਾਂਦਾਹੈ॥੪॥
آپےگُرمُکھِآپےدیۄےَآپےانّم٘رِتُپیِیائِیا॥੪॥
آپے گورمکھ ۔ خود ہی ہے ۔ مرید مرشد۔ آپے دیوے ۔ خود ہی ہے دینے والا ۔ انمرت ۔ پیائیا ۔ خود ہی آبحیات پلاتا ہے ۔
مگر یہ خو دہی مرشد کے وسیلے سے بخشش کرتا ہے اور خود ہی آبحیات جسے انسانی زندگی روحای واخلاقی ہوجاتی ہے الہٰی نام سچ حق و حقیقت بخشش کرتا ہے ۔

ਏਕੋਏਕੁਕਹੈਸਭੁਕੋਈਹਉਮੈਗਰਬੁਵਿਆਪੈ॥
aykoaykkahaisabh ko-ee ha-umaigarab vi-aapai.
Everyone says that God is the One and only, but instead of enshrining Him in their heart, they remain engrossed in egotism and self-conceit.
ਹਰਕੋਈਆਖਦਾਹੈਕਿਇਕਪ੍ਰਭੂਹੀਪ੍ਰਭੂਹੈ, ਪਰਜਿਸਮਨਉਤੇਪ੍ਰਭੂਦਾਨਾਮਲਿਖਣਾਹੈ, ਉਸਉਤੇਹਉਮੈਅਹੰਕਾਰਜ਼ੋਰਪਾਈਰੱਖਦਾਹੈ।l
ایکوایکُکہےَسبھُکوئیِہئُمےَگربُۄِیاپےَ॥
ایکو ایک ۔ صرف واحد ۔ ہونمے گربھ دیاپے۔ خودی اور تکبر بستا ہے ۔
یوں تو ہر شخص خدا خدا پکارتا ہے ۔ مگر ذہن میں خودی اور تکبر بس رہتا ہے ۔

ਅੰਤਰਿਬਾਹਰਿਏਕੁਪਛਾਣੈਇਉਘਰੁਮਹਲੁਸਿਞਾਪੈ॥
antarbaaharaykpachhaanaii-o ghar mahal sinjaapai.
When one realizes that the same one God is dwelling within all and outside in nature, then this way he recognizes that his heart is the mansion of God.
ਜਦੋਂਮਨੁੱਖਆਪਣੇਹਿਰਦੇਵਿਚਅਤੇਸ੍ਰਿਸ਼ਟੀਵਿਚਇਕਪ੍ਰਭੂਨੂੰਪਛਾਣਲਏ, ਤਾਂਇਸਤਰ੍ਹਾਂਉਸਨੂੰਪ੍ਰਭੂਦੇਅਸਥਾਨਦੀਸਿੰਞਾਣਆਜਾਂਦੀਹੈ।
انّترِباہرِایکُپچھانھےَاِءُگھرُمہلُسِجنْاپےَ॥
انتر باہر۔ ذہن ومن اور بیرونیط ور پر ۔ ایو ۔ اس طرح سے ۔ محل ۔ٹھکانہ ۔ سنبھاپے۔ پہچانہوتی ہے ۔
اگر اندرونی طور پر مراد ذہن و قلب میں بھی خدا بسے جس طرح سے بیرونی طور پر خدا خدا پکارتا ہے تبھی الہٰی حقیقت اور ٹھکانے کی پہچان ہو سکتی ہے ۔

ਪ੍ਰਭੁਨੇੜੈਹਰਿਦੂਰਿਨਜਾਣਹੁਏਕੋਸ੍ਰਿਸਟਿਸਬਾਈ॥
parabhnayrhai har door najaanhuaykosarisatsabaa-ee.
O’ pundit, God is near you, don’t deem Him far; He alone is pervading in the entire universe. (ਹੇਪਾਂਡੇ!)ਪ੍ਰਭੂਤੇਰੇਨੇੜੇ ( ਹਿਰਦੇਵਿਚ) ਵੱਸਰਿਹਾਹੈ, ਉਸਨੂੰਆਪਣੇਤੋਂਦੂਰਨਾਹਸਮਝ, ਇਕਪ੍ਰਭੂਹੀਸਾਰੀਸ੍ਰਿਸ਼ਟੀਵਿਚਮੌਜੂਦਹੈ।
پ٘ربھُنیڑےَہرِدوُرِنجانھہُایکوس٘رِسٹِسبائیِ॥
نیڑے ۔ نزدیک ۔ حاضر ۔ سرسٹ سبائی ۔ سارا عالم۔
خدا تمہارے ساتھ اور پاس ہے دور نہ سمجھو سارےعالم میں بس رہا ہے

ਏਕੰਕਾਰੁਅਵਰੁਨਹੀਦੂਜਾਨਾਨਕਏਕੁਸਮਾਈ॥੫॥
aykankaaravarnaheedoojaanaanakayksamaa-ee. ||5||
O’ Nanak! Onkaar, the all pervading God, is pervading everywhere and there is none other at all. ||5||
ਹੇਨਾਨਕ! ਇਕਸਰਬ-ਵਿਆਪਕਪਰਮਾਤਮਾਹੀ (ਹਰਥਾਂ) ਸਮਾਇਆਹੋਇਆਹੈ, ਉਸਤੋਂਬਿਨਾਕੋਈਹੋਰਦੂਜਾਨਹੀਂਹੈ॥੫॥
ایکنّکارُاۄرُنہیِدوُجانانکایکُسمائیِ॥੫॥
ایکنکار ۔ واحد کار ساز ۔ اور دیگر ۔ دوسرا۔ ایک سمائی ۔ واحد بستا ہے ۔
اے نانک اس کے علاوہ نہیں کوئی دوسرا۔

ਇਸੁਕਰਤੇਕਉਕਿਉਗਹਿਰਾਖਉਅਫਰਿਓਤੁਲਿਓਨਜਾਈ॥
is kartay ka-o ki-o gehraakha-o afri-o tuli-o najaa-ee.
O’ pandit, how this Creator can be enshrined in the mind? He cannot be seized and His virtues cannot be estimated.
ਹੇਪਾਂਡੇ! ਇਸਕਰਤਾਰਨੂੰਮਨਵਿਚਕਿਵੇਂਵਸਾਇਆਜਾਸਕਦਾਹੈ? ਇਸਨੂੰਫੜਿਆਨਹੀਂਜਾਸਕਦਾਇਸਦੀਕਦਰਪਾਈਨਹੀਂਜਾਸਕਦੀ।
اِسُکرتےکءُکِءُگہِراکھءُاپھرِئوتُلِئونجائیِ॥
کیئو گیہہ راکھو۔ کسیے پکڑ رکھو۔ اپھر یو ۔ تلیو نہ جائی۔ نہ پکڑا جا سکتا نہ وزن کیا جا سکتا ہے ۔ مراد دل میں بسائیا نہیں جا سکتا۔ مراد اُس کی عظمت کی قدر قیمت کا انداہ نہیں کیا جا سکتا۔
اس کارساز کرتار کو کیسے دل میں بسائیا جا سکتا ہے مراد جب دل میں خودی اور تکبر ہو سمائیا ہوا۔ نہ اس کی قدر و منزلت کا اندازہ کیا جا سکتا ہے ۔

ਮਾਇਆਕੇਦੇਵਾਨੇਪ੍ਰਾਣੀਝੂਠਿਠਗਉਰੀਪਾਈ॥
maa-i-aa kay dayvaanayparaaneejhooththag-ureepaa-ee.
God has administered the intoxicating herb of falsehood to the human who is crazy after worldly wealth.
ਉਸਨੇਮਾਇਆਦੇਮਤਵਾਲੇਜੀਵਨੂੰਝੂਠਦੀਠਗ-ਬੂਟੀਚਮੋੜੀਹੋਈਹੈ,
مائِیاکےدیۄانےپ٘رانھیِجھوُٹھِٹھگئُریِپائیِ॥
مائیا کے دیوانے د نایوی دولت کے مشتاق ۔ چھوٹ ۔ تھگوڑی پائی ۔ جھوت اور کفر کے فریب میں دہوکا کھا گئے ۔
اے دنیاوی دولت کے مشتاق انسان جھوٹ اور کفر تجھے دہو کے اور فریب میں گمراہ کر رہا ہےا۔

ਲਬਿਲੋਭਿਮੁਹਤਾਜਿਵਿਗੂਤੇਇਬਤਬਫਿਰਿਪਛੁਤਾਈ॥
lab lobhmuhtaajvigootayibtab fir pachhutaa-ee.
Being dependent on obsession of eating and greed, one is getting ruined now and repents later.
ਚਸਕੇਤੇਲਾਲਚਦੀਮੁਥਾਜੀਵਿਚਜੀਵਹੁਣਖ਼ੁਆਰਹੋਰਿਹਾਹੈ, ਅਤੇਮਗਰੋਂਪਸਚਾਤਾਪਕਰਦਾਹੈ।
لبِلوبھِمُہتاجِۄِگوُتےاِبتبپھِرِپُچھتائیِ॥
لب ۔ لطف ۔ لوبھ ۔ لالچ ۔ محتاج ۔ دست نگر ۔ انحصار۔ ضرور۔ وگوتے ۔ ذلیل وخوار ۔ اب تب ۔ ابھی اور پھر دوبارہ ۔
لفط اور مزے و لالچ دوسروں کا دست نگر محتاجبنا کر ذلیل وخوار کررہا ہے ۔ ابھی اور بعد میں پچھتائیگا۔

ਏਕੁਸਰੇਵੈਤਾਗਤਿਮਿਤਿਪਾਵੈਆਵਣੁਜਾਣੁਰਹਾਈ॥੬॥
ayksarayvaitaa gatmitpaavaiaavanjaanrahaa-ee. ||6||
It is only when one lovingly remembers God and attains the state of salvation, only then his cycle of birth and death ends. ||6||
ਜਦੋਂਮਨੁੱਖਪ੍ਰਭੂਨੂੰਸਿਮਰਦਾਹੈ ,ਉਹਆਤਮਕਗਤੀਦੀਅਵਸਥਾਪ੍ਰਾਪਤਕਰਦਾਹੈ, ਤਦੋਂਉਸਦਾਜਨਮ-ਮਰਨਮੁੱਕਜਾਂਦਾਹੈ॥੬॥
ایکُسریۄےَتاگتِمِتِپاۄےَآۄنھُجانھُرہائیِ॥੬॥
ا یک سر یو کے ۔ واھد کیخدمت و عبادت ۔ گت مت ۔ حالت یا حالات کا اندازہ یا پہچان ۔ رہائی ختم ہوتا ہے ۔
واحد کی ریاضت و عبادت و خدمت سے ہی صورت و حالات زندگی بہتر ہوتے ہیں اور تناسخ مٹتا ہے ۔

ਏਕੁਅਚਾਰੁਰੰਗੁਇਕੁਰੂਪੁ॥
ayk achaar rang ikroop.
O’ pundit, God Himself is manifesting in all deeds, colors, and forms by pervading in all and everything.
ਹੇਪਾਂਡੇ! ਇਕਗੁਪਾਲਆਪਹੀਜਗਤਦੀਸਾਰੀਕਿਰਤ-ਕਾਰਕਰਰਿਹਾਹੈ, ਇਕਆਪਹੀਸੰਸਾਰਦਾਸਾਰਾਰੂਪਰੰਗਪਰਗਟਕਰਰਿਹਾਹੈ,
ایکُاچارُرنّگُاِکُروُپُ॥
آچار۔ چالن چلن ۔ اخلاق۔ رنگ ۔ پریم ۔ روپ ۔ شکل و صورت ۔
اے پنڈت ۔ اے انسانوں خدا کی واحد شکل وصورت و پریم اور کام ہے

ਪਉਣਪਾਣੀਅਗਨੀਅਸਰੂਪੁ॥
pa-unpaaneeagneeasroop.
Air, water, and fire are all His manifestations in different forms.
ਹਵਾਪਾਣੀਅੱਗਉਸਦਾਆਪਣਾਹੀਸਰੂਪਹਨ,
پئُنھپانھیِاگنیِاسروُپُ॥
اسروپ ۔ اُسی کی ہی شکل و صورت ۔
ہو ا پانی اور آگ اُسی کی ہی شکل وصورت ہے

ਏਕੋਭਵਰੁਭਵੈਤਿਹੁਲੋਇ॥
aykobhavarbhavaitihu lo-ay.
Only the one Divine Soul is permeating in all the three worlds as if one bumble bee is flying through them.
ਇਕਗੁਪਾਲਦੀਜੋਤਿਹੀਸਾਰੇਜਗਤਵਿਚਪਸਰਰਹੀਹੈ।
ایکوبھۄرُبھۄےَتِہُلوءِ॥
بھور ۔ روح۔ نور ۔ بھولے ۔ بستا ہے ۔ تیہہ لوئے ۔ تینوں عالموںمیں۔
اور تینوں عالموں میں اُسی کی نور کی روشنی پھیلی ہوئی ہے ۔

ਏਕੋਬੂਝੈਸੂਝੈਪਤਿਹੋਇ॥
aykoboojhaisoojhai pat ho-ay.
One who understands and comprehends God is honored in His presence.
ਜੋਮਨੁੱਖਉਸਇੱਕਪ੍ਰਭੂਨੂੰ (ਹਰਥਾਂਵਿਆਪਕ) ਸਮਝਦਾਹੈ, (ਜਿਸਨੂੰਹਰਥਾਂਪ੍ਰਭੂਹੀਦਿੱਸਦਾਹੈ), ਉਹਆਦਰ-ਸਤਕਾਰਹਾਸਲਕਰਦਾਹੈ।
ایکوبوُجھےَسوُجھےَپتِہوءِ॥
بوجھے ۔ سمجھتا ہے ۔سوجھے ۔ سمجھے ۔ پت ۔ عزت۔
ایک بوجھے سوبھے پت ہوئے مراد اُس واحد خدا کی وحدت کو سمجھنے اور سوجھ ہونے سے وقار اور عزت و حشمت حاصل ہوتی ہے ۔

ਗਿਆਨੁਧਿਆਨੁਲੇਸਮਸਰਿਰਹੈ॥
gi-aanDhi-aan lay samsarrahai.
One who attains divine wisdom and focuses his mind on remembering God, dwells in the state of spiritual poise.
ਜੋਈਸ਼ਵਰੀਗਿਆਨਪ੍ਰਾਪਤਕਰਕੇਇੱਕਵਾਹਿਗੁਰੂਵਿਚਸੁਰਤਜੋੜਦਾਹੈਉਹਧੀਰੇਜੀਵਨਵਾਲਾਬਣਦਾਹੈ,
گِیانُدھِیانُلےسمسرِرہےَ॥
گیان ۔ دھیان۔ع لم توجہی ۔ سمسر ۔ یکساں ۔ برابر۔
ایسا علم اور سمجھ سو چ اور دھیان لگا کر مرشد کے وسیلے سے اُیسی زندگی کوئیہی متوازن زندگی بسر کتا ہے ۔

ਗੁਰਮੁਖਿਏਕੁਵਿਰਲਾਕੋਲਹੈ॥
gurmukhaykvirlaa ko lahai.
But only a rare one receives divine knowledge by following the Guru’s teachings.
ਪਰਕੋਈਵਿਰਲਾਮਨੁੱਖਹੀਗੁਰੂਦੀਰਾਹੀਂਈਸ਼ਵਰੀਗਿਆਨਪ੍ਰਾਪਤਕਰਦਾਹੈ।
گُرمُکھِایکُۄِرلاکولہےَ॥
ورلا ۔ کوئی لہے ۔ پاتا ہے ۔
ایسا انسان شاذو نادر ہی ہوتا ہے

ਜਿਸਨੋਦੇਇਕਿਰਪਾਤੇਸੁਖੁਪਾਏ॥
jis no day-ay kirpaataysukhpaa-ay.
Only that person receives celestial peace, upon whom God bestows this gift through His grace,
ਕੇਵਲਉਹੀਮਨੁੱਖਸੁਖਮਾਣਦਾਹੈ, ਜਿਸਨੂੰਪ੍ਰਭੂਆਪਣੀਮੇਹਰਨਾਲਇਹਦਾਤਦੇਂਦਾਹੈ,
جِسنودےءِکِرپاتےسُکھُپاۓ॥
کرپا ۔ رحمت ۔ مہربانی ۔
جسے خڈا اپنی کرم و عنایت سے بخشش کر دیتا ہے جو کرتا ہےو ہ الہٰی ملا پ پا لیتا ہے ۔

ਗੁਰੂਦੁਆਰੈਆਖਿਸੁਣਾਏ॥੭॥
guroodu-aaraiaakhsunaa-ay. ||7||
and whom He recites this understanding through the Guru. ||7||
ਅਤੇਜਿਸਨੂੰਗੁਰੂਦੀਰਾਹੀਂ (ਆਪਣੀਸਰਬ-ਵਿਆਪਕਤਾਦਾਉਪਦੇਸ਼) ਸੁਣਾਂਦਾਹੈ॥੭॥
گُروُدُیارےَآکھِسُنھاۓ॥੭॥
وہ مرشد کے ذریعے سناتا ہےا ور آرام و آسائش پاتا ہے ۔

ਊਰਮਧੂਰਮਜੋਤਿਉਜਾਲਾ॥
ooramDhooram jotujaalaa.
(O’ Pandit, enshrine the Name of God in your mind) whose divine light is enlightening the earth and the sky.
(ਹੇਪਾਂਡੇ! ਉਸਗੋਪਾਲਦਾਨਾਮਆਪਣੇਮਨਦੀਪੱਟੀਉਤੇਲਿਖ), ਧਰਤੀਅਤੇਅਕਾਸ਼ਵਿਚਜਿਸਦੀਜੋਤਿਦਾਪਰਕਾਸ਼ਹੈ,
اوُرمدھوُرمجوتِاُجالا॥
اُورم ۔ لہر۔ دہورم ۔ دہول ۔ مٹی ۔ جوت۔ اُجالا۔ نور ۔ روشنی ۔
زمین وآسمان اور سمندر روشن ہیں

ਤੀਨਿਭਵਣਮਹਿਗੁਰਗੋਪਾਲਾ॥
teen bhavan meh gurgopaalaa.
God, the Divine-Guru, who is permeating throughout the three worlds, ਜੋਸਭਤੋਂਵੱਡਾਗੋਪਾਲਤਿੰਨਭਵਨਾਂਵਿਚਵਿਆਪਕਹੈ,
تیِنِبھۄنھمہِگُرگوپالا॥
اُگویا۔ ظاہر۔ ظاہر ہوکر۔
اور تینوں عالم اُسی الہٰی نور سے ۔

ਊਗਵਿਆਅਸਰੂਪੁਦਿਖਾਵੈ॥ਕਰਿਕਿਰਪਾਅਪੁਨੈਘਰਿਆਵੈ॥
oogvi-aa asroopdikhaavai. karkirpaaapunaigharaavai.
when bestowing mercy, He manifests in one’s heart and reveals His form (divine powe), then that person stops wandering and abides within the self.
ਜਦਉਹਗੋਪਾਲਆਪਣੀਕਿਰਪਾਕਰਕੇ (ਗੁਰੂਦੀਰਾਹੀਂ) ਪਰਗਟਹੋਕੇਜਿਸਨੂੰਆਪਣਾ (ਸਰਬ-ਵਿਆਪਕ) ਸਰੂਪਵਿਖਾਂਦਾਹੈ, ਤਾਂਉਹਮਨੁੱਖ (ਭਟਕਣਾਤੋਂਬਚਕੇ) ਆਪਣੇਆਪਵਿਚਟਿਕਜਾਂਦਾਹੈ।
اوُگۄِیااسروُپُدِکھاۄےَ॥ کرِکِرپااپُنےَگھرِآۄےَ॥
اسروُپ ۔ اپنی شکل و صورت ۔ اپنے گھر۔ مراد اپنے مکانانسانی قلب و ذہن۔
ظاہر طور ہر جسے اپنے شکل وصورت دکھاتا ہے ۔ وہ ذہن نشین ہوجاتا ہے ۔

ਊਨਵਿਬਰਸੈਨੀਝਰਧਾਰਾ॥ਊਤਮਸਬਦਿਸਵਾਰਣਹਾਰਾ॥
oonavbarsaineejharDhaaraa. ootamsabadsavaaranhaaraa.
Through the Guru’s sublime words, when God, the embellisher of the world, continuously instills divine virtues in one’s heart.
ਗੁਰੂਦੇਸ੍ਰੇਸ਼ਟਸ਼ਬਦਦੀਰਾਹੀਂਜਦਜਗਤਨੂੰਸੋਹਣਾਬਨਾਣਵਾਲਾਪ੍ਰਭੂ, ਮਨੁੱਖਦੇਹਿਰਦੇਵਿਚਨੇੜੇਹੋਕੇਆਪਣੇਗੁਣਾਦੀਝੜੀਕਰਦਾਹੈ,
اوُنۄِبرسےَنیِجھردھارا॥ اوُتمسبدِسۄارنھہارا॥
اُونو ۔ جھک کر ۔ نیبھر دھار۔ لگاتار موسلادھار ۔ اوتم ۔ بلند عظمت۔ اُوتم سبد۔ مخصوص کلام ۔ سوارنہارا۔ درست ۔ کرنے کی توفیق رکھنے والا۔
اُس کے ذہن و قلب میں آبحیات جھک کر موسلادھار برستا ہے ۔ بلند عظمتمخصوص کلام کی صورت میں جو طرز زندگی کو درست کرنے کی توفیق رکھتا ہے ۔

ਇਸੁਏਕੇਕਾਜਾਣੈਭੇਉ॥
is aykaykaajaanaibhay-o.
Then, that a person understands the secret about this God, and realizes that, ਤਾਂਉਹਮਨੁੱਖਇਸਪ੍ਰਭੂਦਾਇਹਭੇਤਜਾਣਲੈਂਦਾਹੈ, ਕਿ
اِسُایکےکاجانھےَبھیءُ॥
بھیو ۔ راز۔ بھید۔
اس وحدت کا وہ راز و بھید سمجھتا ہے

ਆਪੇਕਰਤਾਆਪੇਦੇਉ॥੮॥
aapaykartaaaapayday-o. ||8||
He Himself is the Creator and He Himself enlightens the world with wisdom. ||8|| ਪ੍ਰਭੂਆਪਹੀਸਾਰੇਜਗਤਦਾਪੈਦਾਕਰਨਵਾਲਾਹੈਤੇਆਪਹੀਇਸਨੂੰਚਾਨਣਦੇਣਵਾਲਾਹੈ॥੮॥
آپےکرتاآپےدیءُ॥੮॥
کرتا۔ کارسازکرنے والا۔ دیو ۔ دینے والا۔ سخی ۔
کہ خڈا ہی کار ساز کرتا ر ہے اور خو دہی طر ز زندگی سکھانے والا اور نعمتیں بخشنے والا سخی داتار ہے ۔

ਉਗਵੈਸੂਰੁਅਸੁਰਸੰਘਾਰੈ॥
ugvaisoorasursanghaarai.
When the mind is enlightened with the teachings imparted by the Guru, then one’s vices vanish as if a new sun has risen, and one slays his inner demons. ਜਦਗੁਰੂਦੇਬਖ਼ਸ਼ੇਹੋਏਗਿਆਨਦੀਰੌਸ਼ਨੀਪੈਦਾਹੁੰਦੀਹੈਤਾਂਮਨੁੱਖਆਪਣੇਅੰਦਰੋਂਕਾਮਾਦਿਕਵਿਕਾਰਾਂਨੂੰਮਾਰਮੁਕਾਂਦਾਹੈ।
اُگۄےَسوُرُاسُرسنّگھارےَ॥
اُگوتے سور۔ جب سورج چڑھتا ہے ۔ مراد جب الہٰی نام حق سچ و حقیقت کا علم روشن ہوتا ہے ۔ اسر۔ دینت۔ برائیاں۔ بدیاں۔ بدکاریاں۔ سنگھارے ۔ ختم کر دیتا ہے ۔
جب انسان اپنی عقل و ہوش سے قائم اور ذہن علم و عمل سے پور نور ہو جاتا ہے تو انسان اپنی برائیوں اور بدکاریوں کو ختم کر دیتا ہے

ਊਚਉਦੇਖਿਸਬਦਿਬੀਚਾਰੈ॥
oocha-o daykhsabadbeechaarai.
And he realizes the supreme God by contemplating on the Guru’s word. ਸਤਿਗੁਰੂਦੇਸ਼ਬਦਦੀਬਰਕਤਿਨਾਲਪਰਮਪੁਰਖਦਾਦੀਦਾਰਕਰਕੇ,)
اوُچءُدیکھِسبدِبیِچارےَ॥
اوچو دیکھ۔ دور اندیشنی ۔ سبد وچارے۔ تو کلام کو سوچتاسمجھتا اور خیال کرتا ہے ۔
دور اندیشی بلند نظریے اور اونچے خیالوں سے کلام کو سوچتا سمجھتا

ਊਪਰਿਆਦਿਅੰਤਿਤਿਹੁਲੋਇ॥
ooparaadanttihu lo-ay.
That person understands that God Himself is the savior of all from the beginning till end and in all the three worlds (universe), ਉਹਮਨੁੱਖਫਿਰਇਉਂਸੋਚਦਾਹੈਕਿਜਦਤਕਸ੍ਰਿਸ਼ਟੀਕਾਇਮਹੈਉਹਪਰਮਾਤਮਾਸਾਰੇਜਗਤਵਿਚਹਰੇਕਦੇਸਿਰਉਤੇਆਪਰਾਖਾਹੈ,
اوُپرِآدِانّتِتِہُلوءِ॥
اوپر ۔ ان سے بلند۔ آدانت ۔ اول و آخر۔ پتیہہ لوئے ۔ تینوں عالموں میں۔
اور خیال آرائی کرکے راستہ زندگی طے کرتا ہے اور اپناتا ہے کہ اول و آخر تینوں عالموں میںا ُسی کا نور ظہور ہے

ਆਪੇਕਰੈਕਥੈਸੁਣੈਸੋਇ॥
aapaykaraikathaisunai so-ay.
and (by pervading in all) God Himself does everything, speaks, and listens.
ਉਹਆਪਹੀ (ਸਭਜੀਵਾਂਵਿਚਵਿਆਪਕਹੋਕੇ) ਕਿਰਤ-ਕੰਮਕਰਦਾਹੈਬੋਲਦਾਹੈਤੇਸੁਣਦਾਹੈ,
آپےکرےَکتھےَسُنھےَسوءِ॥
کتھے سنے ۔ کہتا اور سنتا ہے ۔ سوئے ۔ وہی ۔
اور دیدار پاتا ہے وہی کار ساز کرتار کہتا و سنتا ہے