Urdu-Raw-Page-610

ਨਾਨਕਕਉਗੁਰੁਪੂਰਾਭੇਟਿਓਸਗਲੇਦੂਖਬਿਨਾਸੇ॥੪॥੫॥
naanak ka-o gur pooraa bhayti-o saglay dookh binaasay. ||4||5||
Nanak has met the perfect Guru and all his sorrows have been eradicated by following his teachings. ||4||5||
ਨਾਨਕਨੂੰਪੂਰਾਗੁਰੂਮਿਲਪਿਆਹੈ, ਅਤੇਉਸਦੇਸਾਰੇਦੁੱਖਦੂਰਹੋਗਏਹਨ॥੪॥੫॥
نانک کءُ گُرُ پوُرا بھیٹِئو سگلے دوُکھ بِناسے ॥੪॥੫॥
زندگی کا مقصد پورا ہوا۔ سگللے دوکھ وناسے ۔ تمام وکھ درد مٹے ۔۔
نانک کا ملاپ کامل مرشد سے ہوگیا ہے جس سےتمام دکھ درد اور عذاب مٹ گئے ہیں
ਸੋਰਠਿਮਹਲਾ੫॥
sorath mehlaa 5.
Raag Sorath, Fifth Guru:
سورٹھِ مہلا ੫॥
ਸੁਖੀਏਕਉਪੇਖੈਸਭਸੁਖੀਆਰੋਗੀਕੈਭਾਣੈਸਭਰੋਗੀ॥
sukhee-ay ka-o paykhai sabh sukhee-aa rogee kai bhaanai sabh rogee.
To the spiritually happy person, everyone seems happy; a person who himself is afflicted with vices, for him the entire world is sinner.
ਆਤਮਕਸੁਖਮਾਣਨਵਾਲੇਨੂੰਹਰੇਕਆਤਮਕਸੁਖਮਾਣਦਾਦਿਸਦਾਹੈ, ਵਿਕਾਰਾਂਦੇਰੋਗੀਦੇਖ਼ਿਆਲਵਿਚਸਾਰੀਲੁਕਾਈਹੀਵਿਕਾਰੀਹੈ।
سُکھیِۓ کءُ پیکھےَ سبھ سُکھیِیا روگیِ کےَ بھانھےَ سبھ روگیِ ॥
پیکھے ۔ دیکھتا ہے ۔ بھانے ۔ خیال میں۔ کرادنہار۔ کروانے کی توفیق رکھنے والا ۔
سکون پذیر انسان سب کو پر سکون سمجھتا اور دیکھتا ہے جب کہ بیمار کے خیال میں سب بیمار ہیں
ਕਰਣਕਰਾਵਨਹਾਰਸੁਆਮੀਆਪਨਹਾਥਿਸੰਜੋਗੀ॥੧॥
karan karaavanhaar su-aamee aapan haath sanjogee. ||1||
The Master-God is the doer and cause of everything; state of peace and sorrow of the human beings is under His control. ||1||
ਮਾਲਕ-ਪ੍ਰਭੂਹੀਸਭਕੁਝਕਰਨਤੇਜੀਵਾਂਪਾਸੋਂਕਰਾਣਦੀਸਮਰਥਾਵਾਲਾਹੈ, ਜੀਵਾਂਲਈਆਤਮਕਸੁਖਤੇਆਤਮਕਦੁੱਖਦਾਮੇਲਉਸਨੇਆਪਣੇਹੱਥਵਿਚਰੱਖਿਆਹੋਇਆਹੈ॥੧॥
کرنھ کراۄنہار سُیامیِ آپن ہاتھِ سنّجوگیِ ॥੧॥
کرادنہار۔ کروانے کی توفیق رکھنے والا ۔ سنجوگی ۔ ملاپ (1)
خدا نے کرنے اور کرانے کی توفیق اپنے زیر اختیار رکھی ہوئی ہے (1)
ਮਨਮੇਰੇਜਿਨਿਅਪੁਨਾਭਰਮੁਗਵਾਤਾ॥
man mayray jin apunaa bharam gavaataa. O’ my mind, one who has dispelled his own doubt,
ਹੇਮੇਰੇਮਨ! ਜਿਸਮਨੁੱਖਨੇਆਪਣੇਅੰਦਰੋਂਮੇਰ-ਤੇਰਗਵਾਲਈ,
من میرے جِنِ اپُنا بھرمُ گۄاتا ॥
بھرم گواتا۔ بھٹکنا ۔ دوڑ دہوپ ۔
خدا رسیدہ پاکدامن رہنما کی صحبت و قربت میں جس کے دل کو روحانی سکون ملتا ہے
ਤਿਸਕੈਭਾਣੈਕੋਇਨਭੂਲਾਜਿਨਿਸਗਲੋਬ੍ਰਹਮੁਪਛਾਤਾ॥ਰਹਾਉ॥
tis kai bhaanai ko-ay na bhoolaa jin saglo barahm pachhaataa. rahaa-o. and has recognized God pervading in all the creatures; for that person no one is going astray. ||Pause||
ਜਿਸਨੇਸਭਜੀਵਾਂਵਿਚਪਰਮਾਤਮਾਵੱਸਦਾਪਛਾਣਲਿਆ, ਉਸਦੇਖ਼ਿਆਲਵਿਚਕੋਈਜੀਵਕੁਰਾਹੇਨਹੀਂਜਾਰਿਹਾ ||ਰਹਾਉ॥
تِس کےَ بھانھےَ کوءِ ن بھوُلا جِنِ سگلو ب٘رہمُ پچھاتا ॥ رہاءُ ॥
بھولا۔ گمراہ ۔ سگللو ۔ سب میں برہم۔ خدا۔ رہاؤ۔
اس کے خیالت میں کوئی گمراہ ہے جس نے سب جانداروں میں بستے خدا کی پہچان کر لی ۔ رہاؤ۔
ਸੰਤਸੰਗਿਜਾਕਾਮਨੁਸੀਤਲੁਓਹੁਜਾਣੈਸਗਲੀਠਾਂਢੀ॥
sant sang jaa kaa man seetal oh jaanai saglee thaaNdhee. Those whose mind has been soothed in the company of saints deem that the entire world is enjoying peace and tranquility.
ਸਾਧਸੰਗਤਿਵਿਚਰਹਿਕੇਜਿਸਮਨੁੱਖਦਾਮਨਸ਼ਾਂਤਹੋਜਾਂਦਾਹੈ, ਉਹਸਾਰੀਲੁਕਾਈਨੂੰਹੀਸ਼ਾਂਤ-ਚਿੱਤਸਮਝਦਾਹੈ।
سنّت سنّگِ جا کا منُ سیِتلُ اوہُ جانھےَ سگلیِ ٹھاںڈھیِ ॥
سنت۔ پاکدامن خدا رسیدہ رہبر ۔ سنگ ۔ ساتھ ۔ سیتل ۔ سانت۔ ٹھنڈا۔ اوہ جانے سگللی ٹھانڈی وہ سب کو پر سکون سمجھتا ہے ۔
جن کا ذہن سنتوں کی صحبت میں راس ہوا ہے کہ پوری دنیا امن و آشتی سے لطف اندوز ہو رہی ہے
ਹਉਮੈਰੋਗਿਜਾਕਾਮਨੁਬਿਆਪਿਤਓਹੁਜਨਮਿਮਰੈਬਿਲਲਾਤੀ॥੨॥
ha-umai rog jaa kaa man bi-aapat oh janam marai billaatee. ||2||
One whose mind is afflicted with the disease of egotism, cries in the perpetual pain of birth and death. ||2||
ਜਿਸਦਾਮਨਹਉਮੈ-ਰੋਗਵਿਚਫਸਿਆਰਹਿੰਦਾਹੈ, ਉਹਜੰਮਣਤੇਮਰਣਅੰਦਰਵਿਰਲਾਪਕਰਦਾਹੈ॥੨॥
ہئُمےَ روگِ جا کا منُ بِیاپِت اوہُ جنمِ مرےَ بِللاتیِ ॥੨॥
بیاپت ۔ بسا ہوا ہے ۔ بللالتی ۔ آہ وزاری کرتا ہے (2)
۔ وہ آخر آہ و زاری کرتا ہوا روحانی موت مرتا ہے (2)
ਗਿਆਨਅੰਜਨੁਜਾਕੀਨੇਤ੍ਰੀਪੜਿਆਤਾਕਉਸਰਬਪ੍ਰਗਾਸਾ॥
gi-aan anjan jaa kee naytree parhi-aa taa ka-o sarab pargaasaa.
Everything about righteous living becomes clear to the one whose eyes are enlightened with spiritual wisdom.
ਜਿਸਮਨੁੱਖਦੀਆਂਅੱਖਾਂਵਿਚਬ੍ਰਹਮ-ਬੋਧਦਾਸੁਰਮਾਪੈਜਾਂਦਾਹੈ, ਉਸਨੂੰਆਤਮਕਜੀਵਨਦੀਸਾਰੀਸਮਝਪੈਜਾਂਦੀਹੈ।
گِیان انّجنُ جا کیِ نیت٘ریِ پڑِیا تا کءُ سرب پ٘رگاسا ॥
گیان انجن ۔ علم وہنر کا سرمہ ۔نتری ۔ آنکھوں میں۔ سرب پرگاسا۔ سب طرح کی روشنی ۔
جس کی آنکھوں میں علم کا سرمہ پڑجاتا ہے اسے روحانی واخلاقی زندگی جیتے اور گذارنے کی سمجھ آجاتی ہے
ਅਗਿਆਨਿਅੰਧੇਰੈਸੂਝਸਿਨਾਹੀਬਹੁੜਿਬਹੁੜਿਭਰਮਾਤਾ॥੩॥
agi-aan anDhayrai soojhas naahee bahurh bahurhbharmaataa. ||3||
The one living in the darkness of spiritual ignorance, never thinks about righteous living; he keeps wandering in reincarnations. ||3||
ਗਿਆਨ-ਹੀਨਮਨੁੱਖਨੂੰਅਗਿਆਨਤਾਦੇਹਨੇਰੇਵਿਚ (ਸਹੀਜੀਵਨਬਾਰੇ) ਕੁਝਨਹੀਂਸੁੱਝਦਾ, ਉਹਮੁੜਮੁੜਭਟਕਦਾਰਹਿੰਦਾਹੈ॥੩॥
اگِیانِ انّدھیرےَ سوُجھسِ ناہیِ بہُڑِ بہُڑِ بھرماتا ॥੩॥
اگیان۔ لا علمی ۔ سوجھس ۔ سمجھ ۔ بہوڑ بہوڑ ۔ بار بار ۔ بھرماتا۔ بھٹکتا ہے (3)
۔ مگر لا علم انسان کو لا علم کے اندھیرے کی وجہ سے کوئی سمجھ نہیں آتی گمراہی میں زندگی گذار تا ہے (3)
ਸੁਣਿਬੇਨੰਤੀਸੁਆਮੀਅਪੁਨੇਨਾਨਕੁਇਹੁਸੁਖੁਮਾਗੈ॥
sun baynantee su-aamee apunay naanak ih sukh maagai.
O’ my Master, listen to this prayer of mine; Nanak begs for this comfort,
ਹੇਮੇਰੇਮਾਲਕ! ਮੇਰੀਬੇਨਤੀਸੁਣ , ਨਾਨਕ (ਤੇਰੇਦਰਤੋਂ) ਇਹਸੁਖਮੰਗਦਾਹੈ,
سُنھِ بیننّتیِ سُیامیِ اپُنے نانکُ اِہُ سُکھُ ماگےَ ॥
بینتی ۔ عرض ۔ ارداس۔ جیہہ ۔ جو ۔
اے میرے آقا سنو عرض داشت ۔ نانک یہ دنیا مانگتا ہے
ਜਹਕੀਰਤਨੁਤੇਰਾਸਾਧੂਗਾਵਹਿਤਹਮੇਰਾਮਨੁਲਾਗੈ॥੪॥੬॥
jah keertan tayraa saaDhoo gaavahi tah mayraa man laagai. ||4||6||
that my mind may remain attuned to that place where saints sing Your praises. ||4||6||
(ਕਿ) ਜਿੱਥੇਸੰਤਜਨਤੇਰੀਸਿਫ਼ਤ-ਸਾਲਾਹਦਾਗੀਤਗਾਂਦੇਹੋਣ, ਉੱਥੇਮੇਰਾਮਨਪਰਚਿਆਰਹੇ॥੪॥੬॥
جہ کیِرتنُ تیرا سادھوُ گاۄہِ تہ میرا منُ لاگےَ ॥੪॥੬॥
کیرتن۔ صفت صلاح۔
جہاں پاکدامن خدا رسیدہ روحانی رہبر کا الہٰی صفت صلاح وحمدوثناہ ہو رہی ہو اس میں میر دل محو ومجذوب رہے ۔
ਸੋਰਠਿਮਹਲਾ੫॥
sorath mehlaa 5.
Raag Sorath, Fifth Guru:
سورٹھِ مہلا ੫॥
ਤਨੁਸੰਤਨਕਾਧਨੁਸੰਤਨਕਾਮਨੁਸੰਤਨਕਾਕੀਆ॥
tan santan kaa Dhan santan kaa man santan kaa kee-aa.
When a person surrenders his body, wealth, and mind to the true saints,
ਜਦੋਂਕੋਈਮਨੁੱਖਆਪਣਾਸਰੀਰਆਪਣਾਮਨਆਪਣਾਧਨਸੰਤਜਨਾਂਦੇਹਵਾਲੇਕਰਦੇਂਦਾਹੈ,
تنُ سنّتن کا دھنُ سنّتن کا منُ سنّتن کا کیِیا ॥
تن ۔ جسم سریر ۔ دھن۔ سرمایہ
جب انسان جسمانی طور پر سرمایہ اور دل پادکامن خادمان خدا کے حوالے کر دیتا ہے مراد مکمل طور پر مرید مرشد ہوجاتا ہے خودی مٹا دیتا ہے ۔
ਸੰਤਪ੍ਰਸਾਦਿਹਰਿਨਾਮੁਧਿਆਇਆਸਰਬਕੁਸਲਤਬਥੀਆ॥੧॥
sant parsaad har naam Dhi-aa-i-aa sarab kusal tab thee-aa. ||1||
and by the grace of the Guru, meditates on God’s Name, then spiritual peace comes to him. ||1||
ਤੇਸੰਤਾਂਦੀਕਿਰਪਾਨਾਲਪ੍ਰਭੂਦਾਨਾਮਸਿਮਰਨਕਰਨਲੱਗਪੈਂਦਾਹੈ, ਤਦੋਂਉਸਨੂੰਸਾਰੇਆਤਮਕਸੁਖਮਿਲਜਾਂਦੇਹਨ॥੧॥
سنّت پ٘رسادِ ہرِ نامُ دھِیائِیا سرب کُسل تب تھیِیا ॥੧॥
سنت پر ساد۔ خدا رسیدہ ۔ پاکدامن روحانی رہنما کی رحمت و عنایت سے ۔ نام دھیائیا۔ الہٰی نام سچ و حقیقت میں دھیان لگائیا۔ سرب کسل۔ ہر طر ح سے خوسہال ۔ تب تھای۔ ہوگیا
اور رحمت مرشد سے خدا کی یاد میں محو ومجذوب ہونے لگتا ہے تب وہ ہر طرح سے خوشحال ہوجاتا ہے اور روحانی و زہنی سکون پاتا ہے (1)
ਸੰਤਨਬਿਨੁਅਵਰੁਨਦਾਤਾਬੀਆ॥
santan bin avar na daataa bee-aa.
Except the saints (Guru), there are no other benefactors who can bestow Naam.
ਸੰਤਜਨਾਂਤੋਂਬਿਨਾਪਰਮਾਤਮਾਦੇਨਾਮਦੀਦਾਤਿਦੇਣਵਾਲਾਹੋਰਕੋਈਨਹੀਂਹੈ।
سنّتن بِنُ اۄرُ ن داتا بیِیا ॥
سنتوں (گرو) کے سوا ، کوئی دوسرا مددگار نہیں ہے جو نام دے سکتے ہیں
ਜੋਜੋਸਰਣਿਪਰੈਸਾਧੂਕੀਸੋਪਾਰਗਰਾਮੀਕੀਆ॥ਰਹਾਉ॥
jo jo saran parai saaDhoo kee so paargaraamee kee-aa. rahaa-o.
Whoever follows the teachings of the Guru, becomes capable of going across the worldly ocean of vices. ||Pause||
ਜੇਹੜਾਜੇਹੜਾਮਨੁੱਖਗੁਰੂਦੀ (ਸੰਤਜਨਾਂਦੀ) ਸਰਨਪੈਂਦਾਹੈ, ਉਹਸੰਸਾਰ-ਸਮੁੰਦਰਤੋਂਪਾਰਲੰਘਣਜੋਗਾਹੋਜਾਂਦਾਹੈ॥ਰਹਾਉ॥
جو جو سرنھِ پرےَ سادھوُ کیِ سو پارگرامیِ کیِیا ॥ رہاءُ ॥
جو جو پاکدامن کے زیر سایہ آجاتے ہیں وہ روحانی واخلاقی طور پر اپنی زندگی کامیاب بنا لیتے ہیں۔ رہاؤ۔
ਕੋਟਿਪਰਾਧਮਿਟਹਿਜਨਸੇਵਾਹਰਿਕੀਰਤਨੁਰਸਿਗਾਈਐ॥
kot paraaDh miteh jan sayvaa har keertan ras gaa-ee-ai.
Millions of sins are erased by following the teachings of the Guru and singing the praises of God with adoration.
ਗੁਰੂਦੀਟਹਿਲਕਮਾਉਣਅਤੇਵਾਹਿਗੁਰੂਦੀਕੀਰਤੀਪ੍ਰੇਮਨਾਲਗਾਇਨਕਰਨਦੁਆਰਾਕ੍ਰੋੜਾਂਹੀਪਾਪਨਾਸਹੋਜਾਂਦੇਹਨ।
کوٹِ پرادھ مِٹہِ جن سیۄا ہرِ کیِرتنُ رسِ گائیِئےَ ॥
کوت پرادھ ۔ کروڑوں گناہ ۔ ہر کیرتن رس گاییئے ۔ الہٰی لطف با مزہ ۔ گانے سے ۔ آگے ۔
خدمت خادمان خدا سے کروڑوں گناہ عافو ہوجاتے ہیں مٹ جاتے ہیں۔ انسان الہٰی حمدوثناہ کا مزہ لیتا ہے ۔
ਈਹਾਸੁਖੁਆਗੈਮੁਖਊਜਲਜਨਕਾਸੰਗੁਵਡਭਾਗੀਪਾਈਐ॥੨॥
eehaa sukh aagai mukh oojal jan kaa sang vadbhaagee paa-ee-ai. ||2||
By joining the company of the Guru, which is attained through great good fortune, one receives spiritual peace here and honor hereafter.||2||
ਸੰਤਾਂਦੀਸੰਗਤਕਰਨਨਾਲ, ਜੋਵੱਡੇਭਾਗਾਂਦੁਆਰਾਪ੍ਰਾਪਤਹੁੰਦੀਹੈ, ਇਨਸਾਨਏਥੇਸੁਖੁਅਤੇਅੱਗੇਆਦਰਪਾਦਾਹੈ॥੨॥
ایِہا سُکھُ آگےَ مُکھ اوُجل جن کا سنّگُ ۄڈبھاگیِ پائیِئےَ ॥੨॥
عاقبت میں مکھ اجل۔ سر خرو۔ جن کا سنگ۔ خادمان خدا کا ساتھ (2)
یہاں خوشحالی اور عاقبت میں بارگاہ الہٰی میں سر خروئی پاتا ہے ۔ ایسے شخصوں کا ساتھ بلند قسمت سے ملتا ہے (2)
ਰਸਨਾਏਕਅਨੇਕਗੁਣਪੂਰਨਜਨਕੀਕੇਤਕਉਪਮਾਕਹੀਐ॥
rasnaa ayk anayk gun pooran jan kee kaytak upmaa kahee-ai.
I do not know how far can I describe the glory of Guru; because I have only one tongue and the Guru have countless virtues.
ਮੇਰੀਇੱਕਜੀਭਹੈ (ਸੰਤਜਨ) ਅਨੇਕਾਂਗੁਣਾਂਨਾਲਭਰਪੂਰਹੁੰਦੇਹਨ, ਸੰਤਜਨਾਂਦੀਵਡਿਆਈਕਿਤਨੀਕੁਦੱਸੀਜਾਵੇ?
رسنا ایک انیک گُنھ پوُرن جن کیِ کیتک اُپما کہیِئےَ ॥
انیک ۔ بیشمار۔ پورن ۔ مکمل ۔ کیتک ۔ کتنی ۔ اپما۔ تعریف۔ اگم۔ انسانی رسائی سے بلند۔
زبان ایک ہے اوصاف بیشمار مکمل طور پر ایسے سنتوں کی کتنی تعریف کیجائے ۔ وہ انسانی رسائی سے لند ( جن ) جس بیان بیان سے باہر ہے
ਅਗਮਅਗੋਚਰਸਦਅਬਿਨਾਸੀਸਰਣਿਸੰਤਨਕੀਲਹੀਐ॥੩॥
agam agochar sad abhinaasee saran santan kee lahee-ai. ||3||
The inaccessible, incomprehensible and eternal God is realized only by following the teachings of the Guru. ||3||
ਸੰਤਾਂਦੀਸਰਨਪਿਆਂਹੀਉਹਪ੍ਰਭੂਮਿਲਸਕਦਾਹੈਜੋਪਹੁੰਚਤੋਂਪਰੇ, ਸੋਚ-ਵੀਚਾਰਤੋਂਉਚੇਰਾਅਤੇਸਦੀਵੀਕਾਲ-ਰਹਿਤਹੈ॥੩॥
اگم اگوچر سد ابِناسیِ سرنھِ سنّتن کیِ لہیِئےَ ॥੩॥
اگم۔ انسانی رسائی سے بلند۔ سدا ابناسی ۔ ہمیشہ لافناہ (3)
صدیوی خدا جو لافناہ ہے زیر ایہ خڈا رسیدہ پاکدامن روحانی پیشوا و اخلاقی رہنما ہی الہٰی ملاپ حاصل ہو سکتا ہے (3)
ਨਿਰਗੁਨਨੀਚਅਨਾਥਅਪਰਾਧੀਓਟਸੰਤਨਕੀਆਹੀ॥
nirgun neech anaath apraaDhee ot santan kee aahee.
I am unvirtuous, lowly, sinner and supportless; but I yearn for the refuge of the Guru.
ਮੈਂਗੁਣ-ਹੀਨਹਾਂ, ਨੀਚਹਾਂ, ਨਿਆਸਰਾਹਾਂ, ਵਿਕਾਰੀਹਾਂ, ਮੈਂਸੰਤਾਂਦੀਸਰਨਲੋੜਦਾਹਾਂ।
نِرگُن نیِچ اناتھ اپرادھیِ اوٹ سنّتن کیِ آہیِ ॥
نرگن ۔ بے اوصاف۔ نیچ ۔ کمینہ ۔ اناتھ بے مالک۔ اپرادھی ۔ گاہگار ۔ مجرم۔ آہی ۔ چاہی ۔
مگر سنتوں کا دامن کا پکڑا خانہ داری قبیلہ داری گھریلو ز ندگی کے اندھے کنوئیں میں غرقاب ہو رہی زندگی کو مجھے اخر تک ساتھی دیجیئے
ਬੂਡਤਮੋਹਗ੍ਰਿਹਅੰਧਕੂਪਮਹਿਨਾਨਕਲੇਹੁਨਿਬਾਹੀ॥੪॥੭॥
boodat moh garih anDh koop meh naanak layho nibaahee. ||4||7||
I am drowning in the blind well of household attachments. O’ God stand by Nanak and save him. ||4||7||
ਸੁਆਮੀ! ਮੈਂਗ੍ਰਿਹਸਤਦੇਮੋਹਦੇਹਨੇਰੇਖੂਹਵਿੱਚਡੁਬਰਿਹਾਹਾਂ, ਮੇਰਾਸਾਥਤੋੜਤਕਨਿਬਾਹੋ॥੪॥੭॥
بوُڈت موہ گ٘رِہ انّدھ کوُپ مہِ نانک لیہُ نِباہیِ ॥੪॥੭॥
۔ گریہہ اندھ کوپ ۔ میہہ ۔ خانہ داری گھر یلو زندگی کے اندھیرے کو ئیں میں ڈوب رہا ہوں۔ لیہو نبھاہی ۔ میری امداد کیجیئے ۔ ساتھ دیجئے ۔
اے نانک۔ عرض گذار کہ میں بے اوصاف کمینہ بے سہارا آسرا و ناتواں ہوں بدکار ہوں
ਸੋਰਠਿਮਹਲਾ੫ਘਰੁ੧॥
sorath mehlaa 5 ghar 1.
Raag Sorath, Fifth Guru, First beat:
سورٹھِ مہلا ੫ گھرُ ੧॥
ਜਾਕੈਹਿਰਦੈਵਸਿਆਤੂਕਰਤੇਤਾਕੀਤੈਂਆਸਪੁਜਾਈ॥
jaa kai hirdai vasi-aa too kartay taa kee taiN aas pujaa-ee.
O’ the Creator-God, one who realizes Your presence in his heart, You fulfill his every desire.
ਹੇਕਰਤਾਰ! ਜਿਸਮਨੁੱਖਦੇਹਿਰਦੇਵਿਚਤੂੰਆਵੱਸਦਾਹੈਂ, ਉਸਦੀਤੂੰਹਰੇਕਆਸਪੂਰੀਕਰਦੇਂਦਾਹੈਂ।
جا کےَ ہِردےَ ۄسِیا توُ کرتے تا کیِ تیَں آس پُجائیِ ॥
تاکی تیں آس پجائی ۔ تو نے اس کی امید پوری کی ۔
اے خدا جس کے دلمیں تو بس جاتا ہے اس کی امیدیں پوری کرتا ہے
ਦਾਸਅਪੁਨੇਕਉਤੂਵਿਸਰਹਿਨਾਹੀਚਰਣਧੂਰਿਮਨਿਭਾਈ॥੧॥
daas apunay ka-o too visrahi naahee charanDhoor man bhaa-ee. ||1||
You never go out of the mind of Your devotees, because Your loving devotion seems pleasing to their minds. ||1||
ਆਪਣੇਸੇਵਕਨੂੰਤੂੰਕਦੇਨਹੀਂਵਿੱਸਰਦਾ, ਉਸਦੇਮਨਵਿਚਤੇਰੇਚਰਨਾਂਦੀਧੂੜਪਿਆਰੀਲੱਗਦੀਹੈ॥੧॥
داس اپُنے کءُ توُ ۄِسرہِ ناہیِ چرنھ دھوُرِ منِ بھائیِ ॥੧॥
چرن دہور ۔ خاک پا
اپنے خدمتگار کو بھلاتا نہیں اس کے پاؤں کی خاک میرے دل کو اچھی لگتی ہے (!)
ਤੇਰੀਅਕਥਕਥਾਕਥਨੁਨਜਾਈ॥
tayree akath kathaa kathan na jaa-ee.
O’ God, Your indescribable virtues and vastness cannot be described.
ਹੇਪ੍ਰਭੂ!ਤੂੰਕਿਹੋਜਿਹਾਹੈਂ, ਕੇਡਾਵੱਡਾਹੈਂ-ਇਹਗੱਲਬਿਆਨਨਹੀਂਕੀਤੀਜਾਸਕਦੀ।
تیریِ اکتھ کتھا کتھنُ ن جائیِ ॥
) اکتھ کھتا۔ نا قابل بیان کہانی ۔
اے خدا تیری کہانی بیان سے باہر ہے بیان نہیں ہو سکتی ۔
ਗੁਣਨਿਧਾਨਸੁਖਦਾਤੇਸੁਆਮੀਸਭਤੇਊਚਬਡਾਈ॥ਰਹਾਉ॥
gun niDhaan sukh-daatay su-aamee sabhtay ooch badaa-ee. rahaa-o.
O’ Master, the treasure of virtues and the bestower of peace, Your greatness is the highest of all. ||Pause||

ਹੇਸਾਰੇਗੁਣਾਂਦੇਖ਼ਜ਼ਾਨੇ! ਹੇਸੁਖਦੇਣਵਾਲੇਮਾਲਕ! ਤੇਰੀਵਡਿਆਈਸਭਤੋਂਉੱਚੀਹੈ (ਤੂੰਸਭਨਾਂਤੋਂਵੱਡਾਹੈਂ) ॥ਰਹਾਉ॥
گُنھ نِدھان سُکھداتے سُیامیِ سبھ تے اوُچ بڈائیِ ॥ رہاءُ ॥
گن ندھان۔ اوصاف کا خزانہ ۔ اوچ بڈائی ۔ بلند عظمت ۔ رہاؤ۔
تو ارام و اسائش پہنچانے والا آقا ہے اور سب سے بلند عطمت ہے ۔ رہاؤ۔
ਸੋਸੋਕਰਮਕਰਤਹੈਪ੍ਰਾਣੀਜੈਸੀਤੁਮਲਿਖਿਪਾਈ॥
so so karam karat hai paraanee jaisee tum likh paa-ee.
O’ God, one does that very deed, as is the writ You have written in his destiny.
ਹੇਪ੍ਰਭੂ! ਜੀਵਉਹੀਉਹੀਕਰਮਕਰਦਾਹੈਜਿਹੋਜਿਹੀ (ਆਗਿਆ) ਤੂੰ (ਉਸਦੇਮੱਥੇਤੇ) ਲਿਖਕੇਰੱਖਦਿੱਤੀਹੈ।
سو سو کرم کرت ہےَ پ٘رانھیِ جیَسیِ تُم لِکھِ پائیِ ॥
۔ سوسوکرم ۔ وہ وہ اعمال ۔ پرانی ۔ انسانی ۔
اے خدا انسان وہی اعمال کرتا ہے جو تو نے اس کے اعمالنامے میں تحریر کر رکھے ہیں۔
ਸੇਵਕਕਉਤੁਮਸੇਵਾਦੀਨੀਦਰਸਨੁਦੇਖਿਅਘਾਈ॥੨॥
sayvak ka-o tum sayvaa deenee darsan daykh aghaa-ee. ||2||
You have bestowed the gift of Your devotional worship to Your devotees; they remain satiated beholding Your blessed vision. ||2||
ਆਪਣੇਸੇਵਕਨੂੰਤੂੰਆਪਣੀਸੇਵਾ-ਭਗਤੀਦੀਦਾਤਿਬਖ਼ਸ਼ੀਹੋਈਹੈ, (ਉਹਸੇਵਕ) ਤੇਰਾਦਰਸਨਕਰਕੇਰੱਜਿਆਰਹਿੰਦਾਹੈ॥੨॥
سیۄک کءُ تُم سیۄا دیِنیِ درسنُ دیکھِ اگھائیِ ॥੨॥
اگھائی ۔ تسکین لی (2)
اپنے خدمتگار کو خدمت عنایت کی ہے تیرے دیدار سے اس کی تمنائیں مٹ جاتی ہے وہ سیر ہو جاتا ہے (2)
ਸਰਬਨਿਰੰਤਰਿਤੁਮਹਿਸਮਾਨੇਜਾਕਉਤੁਧੁਆਪਿਬੁਝਾਈ॥
sarab nirantar tumeh samaanay jaa ka-o tuDh aap bujhaa-ee.
O’ God, he alone beholds You pervading in every heart, whom You Yourself bless with this understanding.
ਹੇਪ੍ਰਭੂ! ਜਿਸਮਨੁੱਖਨੂੰਤੂੰਆਪਸਮਝਬਖ਼ਸ਼ਦਾਹੈਂ, ਉਸਨੂੰਤੂੰਸਾਰੇਹੀਜੀਵਾਂਦੇਅੰਦਰਇਕ-ਰਸਸਮਾਇਆਦਿੱਸਦਾਹੈਂ।
سرب نِرنّترِ تُمہِ سمانے جا کءُ تُدھُ آپِ بُجھائیِ ॥
سرب نرنتر ۔ سب میں لگاتار ۔ سمانے ۔ بستا ہے ۔ بجھائی سمجھائیا
) رحمت مرشد سے لا علمی ختم ہوجاتی ہے ہر جگہ تیرا دیدار پاتا ہے ۔

ਗੁਰਪਰਸਾਦਿਮਿਟਿਓਅਗਿਆਨਾਪ੍ਰਗਟਭਏਸਭਠਾਈ॥੩॥
gur parsaad miti-o agi-aanaa pargat bha-ay sabhthaa-ee. ||3||
By the Guru’s Grace, his spiritual ignorance is dispelled and he becomes renowned everywhere.||3||
ਗੁਰੂਦੀਕਿਰਪਾਨਾਲਉਸਮਨੁੱਖਦੇਅੰਦਰੋਂਅਗਿਆਨਤਾਦਾਹਨੇਰਾਮਿਟਜਾਂਦਾਹੈ, ਉਸਦੀਸੋਭਾਸਭਥਾਈਂਪਸਰਜਾਂਦੀਹੈ॥੩॥
گُر پرسادِ مِٹِئو اگِیانا پ٘رگٹ بھۓ سبھ ٹھائیِ ॥੩॥
گر پر ساد۔ رحمت مرشد سے ۔ اگیانا۔ لا لعمی ۔ پر گٹ۔ ظاہر (3)
گرو کی مہربانی سے ، اس کی روحانی لاعلمی دور کردی جاتی ہے اور وہ ہر جگہ مشہور ہوجاتا ہے
ਸੋਈਗਿਆਨੀਸੋਈਧਿਆਨੀਸੋਈਪੁਰਖੁਸੁਭਾਈ॥
so-ee gi-aanee so-ee Dhi-aanee so-ee purakh subhaa-ee.
He alone is spiritually enlightened, he alone is a meditator and he alone is a person of good nature,
ਉਹੀਮਨੁੱਖਗਿਆਨਵਾਨਹੈ, ਉਹੀਮਨੁੱਖਸੁਰਤਿ-ਅੱਭਿਆਸੀਹੈ, ਉਹੀਮਨੁੱਖਪਿਆਰ-ਸੁਭਾਵਵਾਲਾਹੈ,
سوئیِ گِیانیِ سوئیِ دھِیانیِ سوئیِ پُرکھُ سُبھائیِ ॥
سوئی پرکھ سبھائی ۔ نیک نیت ۔ نیک ارادے والا۔
۔ جس پر خدا خود مہربان ہے وہ اپنے دل سے خدا کو کبھی نہیں بھلاتا ہے ۔

ਕਹੁਨਾਨਕਜਿਸੁਭਏਦਇਆਲਾਤਾਕਉਮਨਤੇਬਿਸਰਿਨਜਾਈ॥੪॥੮॥
kaho naanak jis bha-ay da-i-aalaa taa ka-o man tay bisar na jaa-ee. ||4||8||
unto whom God Himself becomes merciful: Nanak says, That person does not forget God from his mind. ||4||8||
ਜਿਸਮਨੁੱਖਉੱਤੇਪਰਮਾਤਮਾਆਪਦਇਆਵਾਨਹੁੰਦਾਹੈ l ਨਾਨਕਆਖਦਾਹੈ- ਉਸਮਨੁੱਖਨੂੰਪਰਮਾਤਮਾਮਨਤੋਂਕਦੇਭੀਨਹੀਂਭੁੱਲਦਾ॥੪॥੮॥
کہُ نانک جِسُ بھۓ دئِیالا تا کءُ من تے بِسرِ ن جائیِ ॥੪॥੮॥
دیالا۔ مہربان۔
اے نانک ۔ بتادے کہ وہی با علم و عالم ہے وہی ہوش و ہواس والا اور دھیان دینے والا ہے وہی پریمی ہے ۔
ਸੋਰਠਿਮਹਲਾ੫॥
sorath mehlaa 5.
Raag Sorath, Fifth Guru:
سورٹھِ مہلا ੫॥
ਸਗਲਸਮਗ੍ਰੀਮੋਹਿਵਿਆਪੀਕਬਊਚੇਕਬਨੀਚੇ॥
sagal samagree mohi vi-aapee kab oochay kab neechay.
The entire world is afflicted with worldly attachments, sometimes it feels elated, and at other times depressed.

ਸਾਰੀਦੁਨੀਆਮੋਹਵਿਚਫਸੀਹੋਈਹੈ (ਇਸਦੇਕਾਰਨ) ਕਦੇ (ਜੀਵ) ਅਹੰਕਾਰਵਿਚਆਜਾਂਦੇਹਨ, ਕਦੇਘਬਰਾਹਟਵਿਚਪੈਜਾਂਦੇਹਨ।
سگل سمگ٘ریِ موہِ ۄِیاپیِ کب اوُچے کب نیِچے ॥
سگل سمگری ۔ ساری قائنات ۔ سدھ ۔ پاک۔
۔ سارا عالم محبت میں گرفتار ہے اس لئے کبھی انسان تکبر اور گھمنڈ میں مگرور ہوکر اپنے آپ کو بلند خیال کرتا ہے اور کبھی گبھراہٹ میں کمزور سمجھتا ہے ۔
ਸੁਧੁਨਹੋਈਐਕਾਹੂਜਤਨਾਓੜਕਿਕੋਨਪਹੂਚੇ॥੧॥
suDh na ho-ee-ai kaahoo jatnaa orhak ko na pahoochay. ||1||
By any of our own efforts, we do not become free from the dirt of worldly attachment, so no one attains the objective of life by one’s own efforts. ||1||
ਆਪਣੇਕਿਸੇਭੀਜਤਨਨਾਲਮੋਹਦੀਮੈਲਤੋਂਪਵਿਤ੍ਰਨਹੀਂਹੋਸਕੀਦਾ।ਕੋਈਭੀਮਨੁੱਖਆਪਣੇਜਤਨਨਾਲਮੋਹਦੇਪਾਰਲੇਬੰਨੇਨਹੀਂਪਹੁੰਚਸਕਦਾ॥੧॥
سُدھُ ن ہوئیِئےَ کاہوُ جتنا اوڑکِ کو ن پہوُچے ॥੧॥
سدھ ۔ پاک۔ اوڑک ۔ آخر (1)
۔ سارا عالم محبت میں گرفتار ہے اس لئے کبھی انسان تکبر اور گھمنڈ میں مگرور ہوکر اپنے آپ کو بلند خیال کرتا ہے اور کبھی گبھراہٹ میں کمزور سمجھتا ہے ۔ کسی طریقے سے محبت کی ناپاکیزگی دور نہیں ہو سکتی اور کوئی بھی اس میں کامیابی حاصل نہیں کر سکتا (1)