Urdu-Raw-Page-382

ਸੋਈ ਅਜਾਣੁ ਕਹੈ ਮੈ ਜਾਨਾ ਜਾਨਣਹਾਰੁ ਨ ਛਾਨਾ ਰੇ ॥
so-ee ajaan kahai mai jaanaa jaananhaar na chhaanaa ray.
One who claims to know, is ignorant; he does not know the Knower of all.
سوئیِاجانھُکہےَمےَجاناجاننھہارُنچھانارے॥
اجان نادان ۔ جانا ۔ جانتا ہوں۔ چھانا۔ پوشیدہ ۔ امیؤ۔ انمرت۔ آب حیات۔ زندگی کو روحانی بنانے والا پانی۔
وہ انسان جو زبان سے اپنے آپ کو روحانی زندگی کا راز دار کہتا ہےاس نے را زداری کی پہچان نہیں کی نادان ہے جس نے پہچان کر لی وہ راز میں نہیں رہ سکتا۔

ਕਹੁ ਨਾਨਕ ਗੁਰਿ ਅਮਿਉ ਪੀਆਇਆ ਰਸਕਿ ਰਸਕਿ ਬਿਗਸਾਨਾ ਰੇ ॥੪॥੫॥੪੪॥
kaho naanak gur ami-o pee-aa-i-aa rasak rasak bigsaanaa ray. ||4||5||44||
Says Nanak, the Guru has given me the Ambrosial Nectar to drink in; savoring it and relishing it, I blossom forth in bliss. ||4||5||44||
کہُنانکگُرِامِءُپیِیائِیارسکِرسکِبِگسانارے॥੪॥੫॥੪੪॥
رسک ۔ بالطف۔ لطف کے ساتھ لوگسانہ خوش ہونا۔
اے نانک ۔ بتادے جسے مرشد نے یہ آب حیات پلاد یا وہ بالطف ہوکر لطف بھری زندگی بسرکرے گا

ਆਸਾ ਮਹਲਾ ੫ ॥
aasaa mehlaa 5.
Aasaa, Fifth Mehl:
آسامہلا੫॥

ਬੰਧਨ ਕਾਟਿ ਬਿਸਾਰੇ ਅਉਗਨ ਅਪਨਾ ਬਿਰਦੁ ਸਮ੍ਹ੍ਹਾਰਿਆ ॥
banDhan kaat bisaaray a-ugan apnaa birad samHaari-a.
He has cut away my bonds, and overlooked my shortcomings, and so He has confirmed His nature.
بنّدھنکاٹِبِسارےائُگناپنابِردُسم٘ہ٘ہارِیا॥
بندھن۔ غلامی ۔ وسارے ۔ بھلائے ۔ اؤگن۔ بدی ۔ گناہگاری ۔ بدکاری ۔ بردھ ۔ عادت ۔ سماریا۔ سنبھالا۔
خدا مریاد ان مرشد کی غلامیاں مٹاتا ہے اس کے بد اوصاف بھلا کر اپنے قدیمی عادت کے مطابق

ਹੋਏ ਕ੍ਰਿਪਾਲ ਮਾਤ ਪਿਤ ਨਿਆਈ ਬਾਰਿਕ ਜਿਉ ਪ੍ਰਤਿਪਾਰਿਆ ॥੧॥
ho-ay kirpaal maat pit ni-aa-ee baarik ji-o partipaari-aa. ||1||
Becoming merciful to me, like a mother or a father, he has come to cherish me as His own child. ||1||
ہوۓک٘رِپالماتپِتنِیائیِبارِکجِءُپ٘رتِپارِیا॥੧॥
کر پال۔ مہربان۔ نیانین ۔ جیسے بارک۔ بچہ ۔ پرتپاریا۔ پرویش کی
ماں باپ کی طرح مہربان ہوکر بچے جان کر پرورش کرتا ہے ۔ (1)۔

ਗੁਰਸਿਖ ਰਾਖੇ ਗੁਰ ਗੋਪਾਲਿ ॥
gursikh raakhay gur gopaal.
The GurSikhs are preserved by the Guru, by the Lord of the Universe.
گُرسِکھراکھےگُرگوپالِ॥
(1) گرسکھ ۔ مرید مرشد ۔ راکھے ۔ حفاظت کی ۔ گرگو پال کدا کی مانندمرشد ۔
مریدان مرشد کا خدا محافظ ہے اور اپنی نگاہ شفقت سے

ਕਾਢਿ ਲੀਏ ਮਹਾ ਭਵਜਲ ਤੇ ਅਪਨੀ ਨਦਰਿ ਨਿਹਾਲਿ ॥੧॥ ਰਹਾਉ ॥
kaadh lee-ay mahaa bhavjal tay apnee nadar nihaal. ||1|| rahaa-o.
He rescues them from the terrible world ocean, casting His Glance of Grace upon them. ||1||Pause||
کاڈھِلیِۓمہابھۄجلتےاپنیِندرِنِہالِ॥੧॥رہاءُ॥
بھؤجل۔ دنیاوی زندگی کے سمندر۔ ندر نہال۔ نگاہ شفقت سے(1) رہاؤ
اس زندگی کے دنیاوی سمندر سے بدیوں اور بدکاریوں سے بچا کر کامیاب بنتا ہے زندگی

ਜਾ ਕੈ ਸਿਮਰਣਿ ਜਮ ਤੇ ਛੁਟੀਐ ਹਲਤਿ ਪਲਤਿ ਸੁਖੁ ਪਾਈਐ ॥
jaa kai simran jam tay chhutee-ai halat palat sukh paa-ee-ai.
Meditating in remembrance on Him, we escape from the Messenger of Death; here and hereafter, we obtain peace.
جاکےَسِمرنھِجمتےچھُٹیِئےَہلتِپلتِسُکھُپائیِئےَ॥
سمرن ۔ یاد ۔ ریاض ۔ ہت پلت۔ ہر دو عالم۔
جس خدا کی یاد سے انسان برائیوں اور بری طاقتوں سے نجات پاتا ہے اور انسان ہر دو عالموں میں آرام و آسائش پاتا ہے

ਸਾਸਿ ਗਿਰਾਸਿ ਜਪਹੁ ਜਪੁ ਰਸਨਾ ਨੀਤ ਨੀਤ ਗੁਣ ਗਾਈਐ ॥੨॥
saas giraas japahu jap rasnaa neet neet gun gaa-ee-ai. ||2||
With every breath and morsel of food, meditate, and chant with your tongue, continually, each and every day; sing the Glorious Praises of the Lord. ||2||
ساسِگِراسِجپہُجپُرسنانیِتنیِتگُنھگائیِئےَ॥੨॥
ساس گراس۔ سانس اور لقمہ ۔ رسنا۔ زبان (2)
اسے ہر لقمہ اور ہر سانس یاد کیجئے اور ہر مدح سرائی و حمد وثناہ کرو۔ (2)

ਭਗਤਿ ਪ੍ਰੇਮ ਪਰਮ ਪਦੁ ਪਾਇਆ ਸਾਧਸੰਗਿ ਦੁਖ ਨਾਠੇ ॥
bhagat paraym param pad paa-i-aa saaDhsang dukh naathay.
Through loving devotional worship, the supreme status is obtained, and in the Saadh Sangat, the Company of the Holy, sorrows are dispelled.
بھگتِپ٘ریمپرمپدُپائِیاسادھسنّگِدُکھناٹھے॥
بھگت۔ عشق الہٰی ۔ پرم پد۔ بلند رتبہ ۔ سادھ سنگ صحبت و قربت پاکدامن ۔
صحبت پاکدامن سے عذاب دور ہوجاتا ہیں الہٰی پیار اور بلند رتبے حاصل ہوتے ہیں

ਛਿਜੈ ਨ ਜਾਇ ਕਿਛੁ ਭਉ ਨ ਬਿਆਪੇ ਹਰਿ ਧਨੁ ਨਿਰਮਲੁ ਗਾਠੇ ॥੩॥
chhijai na jaa-ay kichh bha-o na bi-aapay har Dhan nirmal gaathay. ||3||
I am not worn down, I do not die, and nothing strikes fear in me, since I have the wealth of the Lord’s Immaculate Name in my purse. ||3||
چھِجےَنجاءِکِچھُبھءُنبِیاپےہرِدھنُنِرملُگاٹھے॥੩॥
چھجے ۔ کمزور ۔ بھؤ۔ خوف ویاپے ۔ پیدا ہونا۔ واقع ہونا۔ ہر دھن۔ نرمل گھانٹھے ۔ جب پاک الہٰی دولت دامن میں ہو۔ (3)
جب پاک دولت دامن میں ہو نہ کمزوری آتی ہے اور نہ خوف ہوتا ہے۔ (3)

ਅੰਤਿ ਕਾਲ ਪ੍ਰਭ ਭਏ ਸਹਾਈ ਇਤ ਉਤ ਰਾਖਨਹਾਰੇ ॥
ant kaal parabh bha-ay sahaa-ee it ut raakhanhaaray.
At the very last moment, God becomes the mortal’s Help and Support; here and hereafter, He is the Savior Lord.
انّتِکالپ٘ربھبھۓسہائیِاِتاُتراکھنہارے॥
انت کال۔ بوقت اخرت بوقت مؤت۔ ات اُت۔ ہر دو جہاں میں ۔ راکھنہارے ۔ بچانے والے
خداوندکریم بوقت آخرت زندگی میں مددگار ہوتا ہے ۔ اور ہر دو عالموں میں محافظ ہوتا ہے

ਪ੍ਰਾਨ ਮੀਤ ਹੀਤ ਧਨੁ ਮੇਰੈ ਨਾਨਕ ਸਦ ਬਲਿਹਾਰੇ ॥੪॥੬॥੪੫॥
paraan meet heet Dhan mayrai naanak sad balihaaray. ||4||6||45||
He is my breath of life, my friend, support and wealth; O Nanak, I am forever a sacrifice to Him. ||4||6||45||
پ٘رانمیِتہیِتدھنُمیرےَنانکسدبلِہارے॥੪॥੬॥੪੫॥
پران میت۔ جان سے پیارا دوست ۔ ہیت ۔پیار کرنے والا۔ بلہارے ۔ قربان
مری زندگی کا دوست اسکی محبت ہی میری دؤلت ہے نانک اس پر سو بار قربان

ਆਸਾ ਮਹਲਾ ੫ ॥
aasaa mehlaa 5.
Aasaa, Fifth Mehl:
آسامہلا੫॥

ਜਾ ਤੂੰ ਸਾਹਿਬੁ ਤਾ ਭਉ ਕੇਹਾ ਹਉ ਤੁਧੁ ਬਿਨੁ ਕਿਸੁ ਸਾਲਾਹੀ ॥
jaa tooN saahib taa bha-o kayhaa ha-o tuDh bin kis saalaahee.
Since You are my Lord and Master, what is there for me to fear? Other than You, who else should I praise?
جاتوُنّساہِبُتابھءُکیہاہءُتُدھُبِنُکِسُسالاہیِ॥
صاحب ۔ آقا۔ مالک ۔ بھؤ۔ خوف۔ تدھ بن۔ تیرے بغیر۔ صالاحی ۔ تعریف ۔ سب کچھ ۔ ہر چیز
اے خدا جب تو میرا آقا ہے ۔ تب مجھے خوف کس بات کامیں تیرے بغیر کسی کی مدح سرائی ناہیں کرتا۔

ਏਕੁ ਤੂੰ ਤਾ ਸਭੁ ਕਿਛੁ ਹੈ ਮੈ ਤੁਧੁ ਬਿਨੁ ਦੂਜਾ ਨਾਹੀ ॥੧॥
ayk tooN taa sabh kichh hai mai tuDh bin doojaa naahee. ||1||
You are the One and only, and so do all things exist; without You, there is nothing at all for me. ||1||
ایکُتوُنّتاسبھُکِچھُہےَمےَتُدھُبِنُدوُجاناہیِ॥੧॥
جب تو ساتھ ہے تو سب کچھ میرے پاس ہے تیرے بغیر میرا کوئی مدد گار اور امدادی نہیں۔ (1)

ਬਾਬਾ ਬਿਖੁ ਦੇਖਿਆ ਸੰਸਾਰੁ ॥
baabaa bikh daykhi-aa sansaar.
O Father, I have seen that the world is poison.
بابابِکھُدیکھِیاسنّسارُ॥
(1)بابا۔ اے خدا نے وکھ زہر۔ سنسار۔ علام ۔
اے خدا میں نے دیکھ لیا ہے یہ جہاں ایک زہر ہے ۔

ਰਖਿਆ ਕਰਹੁ ਗੁਸਾਈ ਮੇਰੇ ਮੈ ਨਾਮੁ ਤੇਰਾ ਆਧਾਰੁ ॥੧॥ ਰਹਾਉ ॥
rakhi-aa karahu gusaa-ee mayray mai naam tayraa aaDhaar. ||1|| rahaa-o.
Save me, O Lord of the Universe! Your Name is my only Support. ||1||Pause||
رکھِیاکرہُگُسائیِمیرےمےَنامُتیراآدھارُ॥੧॥رہاءُ॥
گوسائیں۔ میرے مالک ۔ نام الہٰی نام آدھار ۔ آسرا(1) رہاؤ۔
اے میرے آقا میری حفاطت کیجئے میرے اور مجھ کو تیرے نام یعنی سچ کا ہی ۔ زندگی کو آسرا ہے(1) رہاؤ

ਜਾਣਹਿ ਬਿਰਥਾ ਸਭਾ ਮਨ ਕੀ ਹੋਰੁ ਕਿਸੁ ਪਹਿ ਆਖਿ ਸੁਣਾਈਐ ॥
jaaneh birthaa sabhaa man kee hor kis peh aakh sunaa-ee-ai.
You know completely the condition of my mind; who else could I go to tell of it?
جانھہِبِرتھاسبھامنکیِہورُکِسُپہِآکھِسُنھائیِئےَ॥
برتھا۔ (بیکار۔ بے فائدہ ) حالت درد۔
اے خدا تو میرے دل کے سارے حالات سے واقف ہے ۔ تیرے بغیر کون ہے جسے اپنے حالات اسے سنائیں۔

ਵਿਣੁ ਨਾਵੈ ਸਭੁ ਜਗੁ ਬਉਰਾਇਆ ਨਾਮੁ ਮਿਲੈ ਸੁਖੁ ਪਾਈਐ ॥੨॥
vin naavai sabh jag ba-uraa-i-aa naam milai sukh paa-ee-ai. ||2||
Without the Naam, the Name of the Lord, the whole world has gone crazy; obtaining the Naam, it finds peace. ||2||
ۄِنھُناۄےَسبھُجگُبئُرائِیانامُمِلےَسُکھُپائیِئےَ॥੨॥
ناوے ۔ الہٰی نام کے بغیر۔ بورایئیا ۔ دیوانہ (2)
جو کچھ کہنا آپ پاس ہی کہنا ہے ۔ تیرے نام یعنی سچ کے بغیر سارا عالم دیوناہ ہو رہا ہے ۔ سچ اور حقیقت اپنانے اور عمل کرنے سے آرام و آسائش ملتا ہے ۔ (2)

ਕਿਆ ਕਹੀਐ ਕਿਸੁ ਆਖਿ ਸੁਣਾਈਐ ਜਿ ਕਹਣਾ ਸੁ ਪ੍ਰਭ ਜੀ ਪਾਸਿ ॥
ki-aa kahee-ai kis aakh sunaa-ee-ai je kahnaa so parabh jee paas.
What shall I say? Unto whom shall I speak? What I have to say, I say to God.
کِیاکہیِئےَکِسُآکھِسُنھائیِئےَجِکہنھاسُپ٘ربھجیِپاسِ॥
جو کچھ کہنا ہے خدا سے کہوں اس کے علاوہ کس اور کیا

ਸਭੁ ਕਿਛੁ ਕੀਤਾ ਤੇਰਾ ਵਰਤੈ ਸਦਾ ਸਦਾ ਤੇਰੀ ਆਸ ॥੩॥
sabh kichh keetaa tayraa vartai sadaa sadaa tayree aas. ||3||
Everything which exists was created by You. You are my hope, forever and ever. ||3||
سبھُکِچھُکیِتاتیراۄرتےَسداسداتیریِآس॥੩॥
ذرتے ہوتا ہے ۔ آس ۔ اُمید (3)
جب کہ اے جو کچھ اس عالم میں ہو رہا ہے ۔ تیرا کیا ہورہا ہے ۔ لہذا ہمیشہ تجھ سے ہی اُمید باندھی ہے ۔ (3)

ਜੇ ਦੇਹਿ ਵਡਿਆਈ ਤਾ ਤੇਰੀ ਵਡਿਆਈ ਇਤ ਉਤ ਤੁਝਹਿ ਧਿਆਉ ॥
jay deh vadi-aa-ee taa tayree vadi-aa-ee it ut tujheh Dhi-aa-o.
If you bestow greatness, then it is Your greatness; here and hereafter, I meditate on You.
جےدیہِۄڈِیائیِتاتیریِۄڈِیائیِاِتاُتتُجھہِدھِیاءُ॥
وڈیائی ۔ عظمت و شہرت ۔ ات اُت یہاں اور وہاں پر دو عالموں میں مادیاتی و روحانی ۔
اے خدااگر تو کوئی قدرو قیمت اور عزت وحشمت عنایت کرتا ہے تو یہ تیری ہی عظمت و شہرت ہےایر ووعالموں میں تجھے ہی یاد کیا جاتا ہے

ਨਾਨਕ ਕੇ ਪ੍ਰਭ ਸਦਾ ਸੁਖਦਾਤੇ ਮੈ ਤਾਣੁ ਤੇਰਾ ਇਕੁ ਨਾਉ ॥੪॥੭॥੪੬॥
naanak kay parabh sadaa sukh-daatay mai taan tayraa ik naa-o. ||4||7||46||
The Lord God of Nanak is forever the Giver of peace; Your Name is my only strength. ||4||7||46||
نانککےپ٘ربھسداسُکھداتےمےَتانھُتیرااِکُناءُ॥੪॥੭॥੪੬॥
تان طاقت ۔ قوت ناؤ سچ ۔
اے نانک کے خدا۔ ہمیشہ آرام و آسائش عنایت کرنے واے تیرے نام یعنی سچ ہی میرا ایک سہار اہے

ਆਸਾ ਮਹਲਾ ੫ ॥
aasaa mehlaa 5.
Aasaa, Fifth Mehl:
آسامہلا੫॥

ਅੰਮ੍ਰਿਤੁ ਨਾਮੁ ਤੁਮ੍ਹ੍ਹਾਰਾ ਠਾਕੁਰ ਏਹੁ ਮਹਾ ਰਸੁ ਜਨਹਿ ਪੀਓ ॥
amrit naam tumHaaraa thaakur ayhu mahaa ras janeh pee-o.
Your Name is Ambrosial Nectar, O Lord Master; Your humble servant drinks in this supreme elixir.
انّم٘رِتُنامُتُم٘ہ٘ہاراٹھاکُرایہُمہارسُجنہِپیِئو॥
انمرت۔ آب حیات۔ ۔ پانی حیات۔ زندگی ۔ نام۔خدا کا نام۔ جو سچ ہے ۔ مہاں رس۔ عظیم ضائفہ ۔ جنیہہ۔ خادم۔
اے آقا۔ تیرا نام یعنی سچ سے جو روحانی زندگی ورحانیت عنائیت عطا کرنے والا پانی ہے جس سیرے خادم نے نوش کیا

ਜਨਮ ਜਨਮ ਚੂਕੇ ਭੈ ਭਾਰੇ ਦੁਰਤੁ ਬਿਨਾਸਿਓ ਭਰਮੁ ਬੀਓ ॥੧॥
janam janam chookay bhai bhaaray durat binaasi-o bharam bee-o. ||1||
The fearful load of sins from countless incarnations has vanished; doubt and duality are also dispelled. ||1||
جنمجنمچوُکےبھےَبھارےدُرتُبِناسِئوبھرمُبیِئو॥੧॥
چوکے ۔ مٹے ۔ بھے ۔ خوف۔ درت۔ گناہ۔ وناسیؤ۔ متانے ۔ بیؤ۔ دوجا(1)
اس کے دیرینہ خوف وگناہ اور بھٹکنیں دور ہوئیں۔ (2)

ਦਰਸਨੁ ਪੇਖਤ ਮੈ ਜੀਓ ॥
darsan paykhat mai jee-o.
I live by beholding the Blessed Vision of Your Darshan.
درسنُپیکھتمےَجیِئو॥
درسن۔ دیدار ۔ پیکھت ۔ دیکھتے ہی ۔ میں جیؤ۔ جیتا ہوں۔ زندہ ہوں۔
اے سچے مرشد تیرے دیدار سے میرے دل میں روحانی زندگی کے تاثرات و احساس پیدا ہوتے ہیں۔

ਸੁਨਿ ਕਰਿ ਬਚਨ ਤੁਮ੍ਹ੍ਹਾਰੇ ਸਤਿਗੁਰ ਮਨੁ ਤਨੁ ਮੇਰਾ ਠਾਰੁ ਥੀਓ ॥੧॥ ਰਹਾਉ ॥
sun kar bachan tumHaaray satgur man tan mayraa thaar thee-o. ||1|| rahaa-o.
Listening to Your Words, O True Guru, my mind and body are cooled and soothed. ||1||Pause||
سُنِکرِبچنتُم٘ہ٘ہارےستِگُرمنُتنُمیراٹھارُتھیِئو॥੧॥رہاءُ॥
ٹھار۔ شانت۔ ٹھنڈا۔ پر سکون ۔(1) رہاؤ۔
اور تیرہ پندہ کلام سن کر میرے دل کو سکونوٹھنڈک نصیبت ہوتی ۔(1)۔ رہاؤ۔

ਤੁਮ੍ਹ੍ਹਰੀ ਕ੍ਰਿਪਾ ਤੇ ਭਇਓ ਸਾਧਸੰਗੁ ਏਹੁ ਕਾਜੁ ਤੁਮ੍ਹ੍ਹ ਆਪਿ ਕੀਓ ॥
tumHree kirpaa tay bha-i-o saaDhsang ayhu kaaj tumH aap kee-o.
By Your Grace, I have joined the Saadh Sangat, the Company of the Holy; You Yourself have caused this to happen.
تُم٘ہ٘ہریِک٘رِپاتےبھئِئوسادھسنّگُایہُکاجُتُم٘ہ٘ہآپِکیِئو॥
کرپا۔ مہربانی ۔ سادھ سنگ ۔ صحبت و قربت پاکدامن ۔ کاج ۔ کام ڈر۔ پختہ ۔
آپ کی مہربانی سے ، میں صحبت پاک کی سنگت میں شامل ہوا۔ آپخود ہی اس کا سبب بنے

ਦਿੜੁ ਕਰਿ ਚਰਣ ਗਹੇ ਪ੍ਰਭ ਤੁਮ੍ਹ੍ਹਰੇ ਸਹਜੇ ਬਿਖਿਆ ਭਈ ਖੀਓ ॥੨॥
dirh kar charan gahay parabh tumHray sehjay bikhi-aa bha-ee khee-o. ||2||
Holding fast to Your Feet, O God, the poison is easily neutralized. ||2||
دِڑُکرِچرنھگہےپ٘ربھتُم٘ہ٘ہرےسہجےبِکھِیابھئیِکھیِئو॥੨॥
چرن ۔ پاوں ۔ گہے ۔ پکڑے ۔ سہجے ۔ آسانی سے ۔ دکھیا۔ دنیاوی دولت کا تاچر ۔ کھیؤ ۔ مٹا۔ ختم
اے خدا تیرے پاوں مضبوطی سے پکڑ کر میں نے اس زہر کو ختم کر لیا ہے

ਸੁਖ ਨਿਧਾਨ ਨਾਮੁ ਪ੍ਰਭ ਤੁਮਰਾ ਏਹੁ ਅਬਿਨਾਸੀ ਮੰਤ੍ਰੁ ਲੀਓ ॥
sukh niDhaan naam parabh tumraa ayhu abhinaasee mantar lee-o.
Your Name, O God, is the treasure of peace; I have received this everlasting Mantra.
سُکھنِدھاننامُپ٘ربھتُمراایہُابِناسیِمنّت٘رُلیِئو॥
سکھ ندھان۔ سکھوں کا خزانہ ۔ نام۔ سچ ۔ حقیقت ۔ اوناسی ۔ لافناہ۔ نہ ختم ہونے والا۔ منتر۔ نصیحت ۔ سبق۔
اےخدا تیرا نام سچ جو آرام و آسائش کا خزانہ ہے ۔تیرا لافناہ کلام و سبق اپنایا

ਕਰਿ ਕਿਰਪਾ ਮੋਹਿ ਸਤਿਗੁਰਿ ਦੀਨਾ ਤਾਪੁ ਸੰਤਾਪੁ ਮੇਰਾ ਬੈਰੁ ਗੀਓ ॥੩॥
kar kirpaa mohi satgur deenaa taap santaap mayraa bair gee-o. ||3||
Showing His Mercy, the True Guru has given it to me, and my fever and pain and hatred are annulled. ||3||
کرِکِرپاموہِستِگُرِدیِناتاپُسنّتاپُمیرابیَرُگیِئو॥੩॥
ستگر ۔ سچا مرشد ۔ تاپ سنتاپ۔ غصہ وعذاب ۔ ویر ۔ دشمنی ۔ گیؤ ختم ہوئی ۔ (3)
اور اپنیکرم و عنایت سے سچے مرشد نے دیا جس سے میرے دل سے تمام عذاب تکلیفات دشمنیاں اور جھگڑ ختم ہو گئے ۔ (3)

ਧੰਨੁ ਸੁ ਮਾਣਸ ਦੇਹੀ ਪਾਈ ਜਿਤੁ ਪ੍ਰਭਿ ਅਪਨੈ ਮੇਲਿ ਲੀਓ ॥
Dhan so maanas dayhee paa-ee jit parabh apnai mayl lee-o.
Blessed is the attainment of this human body, by which God blends Himself with me.
دھنّنُسُمانھسدیہیِپائیِجِتُپ٘ربھِاپنےَمیلِلیِئو॥
ویہی ۔ جسم کیرتن ۔ صف صلاح ۔
خوش قسمتی سے یہ انسانی جسم حاصل ہوا ہے ۔ جس کی وجہ سے الہٰی ملاپ حاصل

ਧੰਨੁ ਸੁ ਕਲਿਜੁਗੁ ਸਾਧਸੰਗਿ ਕੀਰਤਨੁ ਗਾਈਐ ਨਾਨਕ ਨਾਮੁ ਅਧਾਰੁ ਹੀਓ ॥੪॥੮॥੪੭॥
Dhan so kalijug saaDhsang keertan gaa-ee-ai naanak naam aDhaar hee-o. ||4||8||47||
Blessed, in this Dark Age of Kali Yuga, is the Saadh Sangat, the Company of the Holy, where the Kirtan of the Lord’s Praises are sung.O Nanak, the Naam is my only Support. ||4||8||47||
دھنّنُسُکلِجُگُسادھسنّگِکیِرتنُگائیِئےَنانکنامُادھارُہیِئو॥੪॥੮॥੪੭॥
آدھار۔ آسرا۔
اے نانک ہوایہ دورزماں بھی مبارک ہے جو صحبت و قربت پاکدامن الہٰی حمد وثناہ کی جائے ارو سچ کا ہی دل کو سہارا ہے ۔ اور دل میں بسا رہے ۔