Urdu-Master-8

Page 161
اِسُ کلِجُگ مہِ کرم دھرمُ ن کۄئی ॥
کلی کا جنمُ چنّڈال کےَ گھرِ ہۄئی ॥
نانک نام بِنا کۄ مُکتِ ن ہۄئی ॥4॥ 10 ॥ 30 ॥
گئُڑی محلا 3 گُیاریری ॥
سچا امرُ سچا پاتِشاہُ ॥
منِ ساچےَ راتے ہرِ ویپرواہُ ॥
سچےَ محلِ سچِ نامِ سماہُ ॥1॥
سُݨِ من میرے سبدُ ویِچارِ ॥
رام جپہُ بھوجلُ اُترہُ پارِ ॥1॥ رہاءُ ॥
بھرمے آوےَ بھرمے جاءِ ॥
اِہُ جگُ جنمِیا دۄُجےَ بھاءِ ॥
منمُکھِ ن چیتےَ آوےَ جاءِ ॥2॥
آپِ بھُلا کِ پ٘ربھِ آپِ بھُلائِیا ۔ ॥
اِہُ جیءُ وِڈاݨی چاکری لائِیا ॥
مہا دُکھُ کھٹے بِرتھا جنمُ گوائِیا ॥3॥
کِرپا کرِ ستِگُرۄُ مِلاۓ ॥
ایکۄ نامُ چیتے وِچہُ بھرمُ چُکاۓ ॥
نانک نامُ جپے ناءُ نءُ نِدھِ پاۓ ॥4॥ 11 ॥ 31 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 3॥
جِنا گُرمُکھِ دھِیائِیا تِن پۄُچھءُ جاءِ ॥
گُر سیوا تے منُ پتیِیاءِ ॥
سے دھنونّت ہرِ نامُ کماءِ ॥
پۄُرے گُر تے سۄجھی پاءِ ॥1॥
ہرِ ہرِ نامُ جپہُ میرے بھائی ۔ ॥
گُرمُکھِ سیوا ہرِ گھال تھاءِ پائی ॥1॥ رہاءُ ॥
آپُ پچھاݨےَ منُ نِرملُ ہۄءِ ॥
جیِون مُکتِ ہرِ پاوےَ سۄءِ ॥
ہرِ گُݨ گاوےَ متِ اۄُتم ہۄءِ ॥
سہجے سہجِ سماوےَ سۄءِ ॥2॥
دۄُجےَ بھاءِ ن سیوِیا جاءِ ॥
ہئُمےَ مائِیا مہا بِکھُ کھاءِ ॥
پُتِ کُٹنّبِ گ٘رِہِ مۄہِیا ماءِ ॥
منمُکھِ انّدھا آوےَ جاءِ ॥3॥
ہرِ ہرِ نامُ دیوےَ جنُ سۄءِ ॥
اندِنُ بھگتِ گُر سبدی ہۄءِ ॥
گُرمتِ وِرلا بۄُجھےَ کۄءِ ॥
نانک نامِ سماوےَ سۄءِ ॥4॥ 12 ॥ 32 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 3॥
گُر سیوا جُگ چارے ہۄئی ॥
پۄُرا جنُ کار کماوےَ کۄئی ॥
اکھُٹُ نام دھنُ ہرِ تۄٹِ ن ہۄئی ॥
ایَتھےَ سدا سُکھُ درِ سۄبھا ہۄئی ॥1॥
اے من میرے بھرمُ ن کیِجےَ ॥
گُرمُکھِ سیوا انّم٘رِت رسُ پیِجےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
ستِگُرُ سیوہِ سے مہا پُرکھ سنّسارے ॥
آپِ اُدھرے کُل سگل نِستارے ॥
ہرِ کا نامُ رکھہِ اُر دھارے ॥
نامِ رتے بھئُجل اُترہِ پارے ॥2॥
ستِگُرُ سیوہِ سدا منِ داسا ॥
ہئُمےَ مارِ کملُ پرگاسا ॥
انہدُ واجےَ نِج گھرِ واسا ॥
نامِ رتے گھر ماہِ اُداسا ॥3॥
ستِگُرُ سیوہِ تِن کی سچی باݨی ॥
جُگُ جُگُ بھگتی آکھِ وکھاݨی ॥
اندِنُ جپہِ ہرِ سارنّگپاݨی ॥
کالی یوجا کی اس تاریک دور میں ، کوئی بھی اچھے کرموں یا دھرمی ایمان میں دلچسپی رکھتا ہے ۔ یہ تاریک دور بدی کے گھر میں پیدا ہوا تھا. اے نانک ، نام کے بغیر ، رب کا نام ، کوئی بھی آزاد نہیں ہے. سچا خُداوند بادشاہ ہے ، سچا اُس کا شاہی فرمان ہے ۔ وہ جن کے ذہنوں کو سچا کرنے کے لئے باخبر کر رہے ہیں, لاپرواہ رب اس کی موجودگی کے حقیقی مینشن میں داخل, اور حقیقی نام میں ضم. || 1 | | اے میرے ذہن کو سنو اور سہاباڈ کے کلام پر غور کرو ۔ خداوند کے نام کو گانا ، اور خوفناک دنیا سمندر پر پار. شک میں وہ آتا ہے ، اور شک میں وہ جاتا ہے. یہ دنیا دوگانگی کی محبت سے پیدا ہوتی ہے ۔ مانموکہ کی طرف سے خداوند کو یاد نہیں کرتا ۔ وہ آ رہا ہے اور تناسب میں جا رہا ہے. || 2 | | کیا وہ خود گمراہ ہو جاتا ہے یا خدا اسے گمراہ کرتا ہے ؟ اس روح کو کسی اور کی خدمت کا حکم دیا جاتا ہے. یہ صرف خوفناک درد کماتا ہے ، اور یہ زندگی بیکار میں کھو گیا ہے. || 3 | | اُس کا فضل دینا ، وہ ہمیں حقیقی گرو سے ملنے کی طرف راہنمائی کرتا ہے ۔ ایک نام یاد کرتے ہیں ، شک میں اندر سے باہر نکالا جاتا ہے.اے نانک ، نام کا جاپ ، خُداوند کا نام ، ناموں کا نو خزانہ حاصل کیا جاتا ہے ۔ جاؤ اور گورموکہس سے پوچھو جو خداوند پر غور کرتے ہیں ۔ گرو کی خدمت کرتے ہوئے ، ذہن مطمئن ہے. وہ جو خُداوند کے نام کماتے ہیں وہ دولت مند ہیں ۔ کامل گرو کے ذریعے ، تفہیم حاصل کی جاتی ہے. || 1 | | خُداوند کے نام کو گانا ، حر ، حر ، میری قسمت کے بہن بھائی ۔ گورموکہس خُداوند کی خِدمت کرتے ہیں اور وہ قبول کئے جاتے ہیں ۔ جو لوگ خود کو پہچانتے ہیں ان کا من خالص ہو جاتا ہے ۔ وہ موکت بن جاتے ہیں جو ابھی تک زندہ ہیں اور وہ خداوند کو تلاش کرتے ہیں ۔ خُداوند کی جلالی حمد کو گانا ، عقل خالص اور شاندار ہو جاتی ہے ، اور وہ آسانی سے خُداوند میں انٹرویو ہیں ۔ || 2 | | دوگانگی کی محبت میں ، کوئی بھی خُداوند کی عبادت نہیں کر سکتا ۔ انانیت اور مایا میں وہ زہریلا زہر کھاتے ہیں ۔ وہ جذباتی طور پر اپنے بچوں ، خاندان اور گھر سے منسلک ہیں. نابینا ، خود اپنی مانموکہس آتے ہیں اور تناسخ میں جاتے ہیں ۔ || 3 | | وہ جن کو خداوند نے اپنا نام رکھے ، گرو کی سہاباڈ کے کلام کے وسیلہ سے اُس کو رات اور دن کی عبادت کی ۔ گرو کی تعلیمات کو سمجھنے والوں کو کتنا نایاب ہے! اے نانک, وہ نام میں جذب کر رہے ہیں, رب کی گرو کی خدمت چار عمر بھر میں انجام دی گئی ہے. بہت کم لوگ ان کامل لوگوں کو جو یہ اچھا کام کرتے ہیں ہیں. خُداوند کے نام کا مال لازوال ہے ۔ اسے کبھی ختم نہیں کیا جائے گا ۔ اس دنیا میں ، یہ ایک مستقل امن لاتا ہے ، اور رب کے دروازے پر ، یہ اعزاز لاتا ہے. اے میرے دماغ کو اس کے بارے میں کوئی شک نہیں ہے ۔ وہ گورموکہس جو خدمت کرتے ہیں ، مہکنا امرت میں پیتے ہیں ۔ جو لوگ سچے گرو کی خدمت کرتے ہیں وہ دنیا کے سب سے بڑے لوگ ہیں ۔ وہ خود کو بچانے ، اور وہ اپنی تمام نسلوں کو بھی نجات دیتے ہیں. وہ اپنے دلوں کو مضبوطی سے کلاسپاد خُداوند کا نام رکھتے ہیں ۔ نام باخبر ، وہ خوفناک دنیا سمندر سے زیادہ پار. || 2 | | حقیقی گرو کی خدمت کرتے ہوئے ، من ہمیشہ کے لیے حلیم ہو جاتا ہے ۔ انانیت ہے ، اور دل کے لوٹس پھول آگے. وہ خود کے گھر کے اندر رہنے کے طور پر ، غیر مارا باخبر کے نام پر ، وہ اپنے گھر کے اندر الگ رہتے ہیں ۔ || 3 | | سچے گرو کی خدمت کرتے ہوئے ان کے الفاظ سچے ہیں ۔ عمر بھر میں ، عقیدت مندوں کو گانا اور ان الفاظ کو دوبارہ کریں. رات اور دن ، وہ رب ، زمین کے رب پر غور.

نانک نامِ رتے نِہکیول نِرباݨی ॥4॥ 13 ॥ 33 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 3॥
ستِگُرُ مِلےَ وڈبھاگِ سنّجۄگ ॥
ہِردےَ نامُ نِت ہرِ رس بھۄگ ॥1॥
گُرمُکھِ پ٘راݨی نامُ ہرِ دھِیاءِ ॥
جنمُ جیِتِ لاہا نامُ پاءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
گِیانُ دھِیانُ گُر سبدُ ہےَ میِٹھا ॥
گُر کِرپا تے کِنےَ وِرلےَ چکھِ ڈیِٹھا ॥2॥
کرم کانْڈ بہُ کرہِ اچار ॥
بِنُ ناوےَ دھ٘رِگُ دھ٘رِگُ اہنّکار ॥3॥
بنّدھنِ بادھِئۄ مائِیا پھاس ॥
جن نانک چھۄُٹےَ گُر پرگاس ॥4॥ 14 ॥ 34 ॥
محلا 3 گئُڑی بیَراگݨِ ॥
جیَسی دھرتی اۄُپرِ میگھُلا برستُ ہےَ
کِیا دھرتی مدھے پاݨی ناہی ۔ ॥
جیَسے دھرتی مدھے پاݨی پرگاسِیا
بِنُ پگا ورست پھِراہی ॥1॥
بابا تۄُنّ ایَسے بھرمُ چُکاہی ॥
جۄ کِچھُ کرتُ ہےَ سۄئی کۄئی ہےَ رے
تیَسے جاءِ سماہی ॥1॥ رہاءُ ॥
اِستری پُرکھ ہۄءِ کےَ
کِیا اۄءِ کرم کماہی ۔ ॥
نانا رۄُپ سدا ہہِ تیرے
تُجھ ہی ماہِ سماہی ॥2॥
اِتنے جنم بھۄُلِ پرے سے
جا پائِیا تا بھۄُلے ناہی ॥
جا کا کارجُ سۄئی پرُ جاݨےَ
جے گُر کےَ سبدِ سماہی ॥3॥
تیرا سبدُ تۄُنّہےَ ہہِ آپے
بھرمُ کہا ہی ۔ ॥
نانک تتُ تت سِءُ مِلِیا
پُنرپِ جنمِ ن آہی ॥4॥1॥ 15 ॥ 35 ॥
گئُڑی بیَراگݨِ محلا 3॥
سبھُ جگُ کالےَ وسِ ہےَ
بادھا دۄُجےَ بھاءِ ॥
ہئُمےَ کرم کماودے
منمُکھِ مِلےَ سزاءِ ॥1॥
میرے من گُر چرݨی چِتُ لاءِ ॥
گُرمُکھِ نامُ نِدھانُ لےَ
درگہ لۓ چھڈاءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
لکھ چئُراسیِہ بھرمدے
منہٹھِ آوےَ جاءِ ॥
گُر کا سبدُ ن چیِنِئۄ
پھِرِ پھِرِ جۄنی پاءِ ॥2॥
گُرمُکھِ آپُ پچھاݨِیا
ہرِ نامُ وسِیا منِ آءِ ॥
اندِنُ بھگتی رتِیا
ہرِ نامے سُکھِ سماءِ ॥3॥
منُ سبدِ مرےَ پرتیِتِ ہۄءِ
ہئُمےَ تجے وِکار ॥
جن نانک کرمی پائیِئنِ
ہرِ ناما بھگتِ بھنّڈار ॥4॥2॥ 16 ॥ 36 ॥
گئُڑی بیَراگݨِ محلا 3॥
پیئیِئڑےَ دِن چارِ ہےَ
ہرِ ہرِ لِکھِ پائِیا ॥
سۄبھاونّتی نارِ ہےَ
گُرمُکھِ گُݨ گائِیا ॥
پیوکڑےَ گُݨ سنّملےَ
ساہُرےَ واسُ پائِیا ॥
گُرمُکھِ سہجِ سماݨیِیا
ہرِ ہرِ منِ بھائِیا ॥1॥
سسُرےَ پیئیِۓَ پِرُ وسےَ
کہُ کِتُ بِدھِ پائیِۓَ ۔ ॥
آپِ نِرنّجنُ الکھُ ہےَ
آپے میلائیِۓَ ॥1॥ رہاءُ ॥
اے نانک ، وہ جو خُدا کے نام سے حواریوں ہیں وہ حقیقی طور پر علیحدہ ہیں ، اور دنیاوی بانڈز سے غلامی نابالغ ہیں ۔ عظیم قسمت اور قسمت کے ذریعے ، ایک سچے گرو کے ساتھ ملتا ہے ، نام اس کے دل کے اندر رہتا ہے اور وہ روزانہ خدا کے آب حاصل ہے ، نام. || 1 | | جو محبت گرو کی تعلیمات کے ذریعے خدا کے نام پر یاد ، وہ زندگی کے کھیل میں جیت ، اور نام کی دولت کماتا. جس کے لئے گرو کا کلام میٹھا لگتا ہے اس کے لئے گرو کا کلام مراقبہ اور الہٰی حکمت ہے ۔لیکن صرف ایک نادر شخص ، گرو کے فضل سے ، اس مٹھاس کا مزہ چکھا ہے ۔ || 2 | | وہ لوگ جو مذہبی رسومات اور اچھے اعمال کا مظاہرہ کرتے ہیں ، بغیر نام ، یہ رسومات اور اعمال انا پیدا کرتے ہیں اور ان کی زندگی برباد ہو جاتی ہے ۔ || 3 | نام کے بغیر ایک شخص دنیاوی منسلکات کی پھسری کے لئے پابند رہتا ہے ۔ اے ‘ نانک, وہ صرف گرو کے کلام کی طرف سے روشن خیال جب رہا ہے. بادلوں زمین پر بارش ڈالیں ، زمین کے اندر بھی پانی نہیں ہے ؟اسی طرح موجودہ حکمت کے باوجود اضافی روشن ضمیری کی ضرورت ہے ۔ زمین کے اندر پانی دریاؤں کی شکل میں اظہارات ہے ، لیکن بادلوں کو مختلف جگہوں پر بارش ہوتی ہے. اسی طرح ، اگرچہ ویدوں کا علم کچھ اشرافیہ کے لئے دستیاب ہے, اب بھی ایک زبان میں مزید الہی علم کو پھیلانے کے لئے ضرورت ہے جو عام لوگوں کی طرف سے سمجھا جا سکتا ہے. || 1 | | اے بابا ، براہ مہربانی اس شک سے چھٹکارا حاصل کریں ، سب کچھ اور آخر میں اس میں واپس ضم کرتا. ایک عورت یا ایک آدمی کے طور پر, کوئی بھی آپ کے بغیر کچھ نہیں کر سکتے ہیں. اے خدا ، تمام مختلف شکلوں نے ہمیشہ تمہارا رہا ہے ، اور وہ سب بالآخر آپ میں واپس آتے ہیں. خدا کو بھول کر ، وہ بہت سے پیدائش کے ذریعے جاتے ہیں ، لیکن جب وہ الہی حکمت حاصل کرتے ہیں تو ان کی آوارگی رک جاتی ہےوہ لوگ جو گرو کے کلام کے لئے باخبر رہتے ہیں یہ سمجھتے ہیں کہ وہ جس کی تخلیق یہ دنیا ہے ، اس کے بارے میں جانتا ہےاے خدا ، یہ آپ کا کلام ہے اور آپ سب اپنے آپ کو ہر جگہ وسعت ہیں ۔ کوئی شک کیوں ہونا چاہئے ؟اے نانک ، جس کی روح سپریم لائٹ کے ساتھ متحد کرتی ہے ، اس کے لئے پیدائش اور موت کی کوئی زیادہ سائیکل نہیں ہے. دوگانگی کی محبت کی طرف سے پابند ، تقریبا پوری دنیا روحانی طور پر مر گیا ہے. سوایاد کی طرف سے دوگانگی, ان خود ابھیمانی افراد انا کی طرف سے حوصلہ افزائی اعمال کا ارتکاب اور خدا کی عدالت میں سزا سے نوازا جاتا ہے. میرے ذہن, گرو کی تعلیمات پر آپ کے شعور پر توجہ مرکوزگرو کی تعلیمات کے ذریعہ ، نام کا خزانہ حاصل کریں ، جو آپ کو الہی عدالت میں بچائے گا. ان کے ذہن کی مگراپن کی وجہ سے وہ لاکھوں اوتاروں سے گھومتے ہیں اور پیدائش اور موت کے ادوار میں رہتے ہیں ۔ان لوگوں نے گرو کے کلام پر ظاہر نہیں کیا ، اور اس وجہ سے وہ دوبارہ پیٹ میں ڈال دیا جاتا ہے. || 2 | | گرو کے پیروکار جو خود کو سمجھتا ہے ، خدا کا نام اس کے دماغ کے اندر رہنے کے لئے آتا ہےہمیشہ سے عقیدت کی عبادت کے ساتھ حواریوں ، وہ خدا کے نام میں ضم ہو جاتا ہے اور اس طرح خوشی حاصل ہےایک گرو کے کلام کے ذریعے اپنی انا کو خارج کر دیتا ہے اور اس میں ایمان تیار, اور دیگر تمام دستبرداراے ‘ نانک ، یہ صرف خدا کے فضل کے ذریعے ہے کہ ایک خدا کے نام اور عقیدت کے خزانے کو حاصل ہے. خدا نے اس بات کا تقرر کیا ہے کہ دلہن روح اس کے والدین کے گھر میں رہیں گے (یہ دنیا) صرف چند دنوں کے لئے. معزز ہے کہ روح دلہن ، گرو کی تعلیمات کے بعد ، خدا کی تعریف گاتی ہےاس دنیا میں فضائل حاصل کرنے والے روح دلہن خدا کی عدالت میں عزت ملتا ہےروح دلہن جس کو خدا منباون لگتا ہے, گرو کے فضل کے ذریعے اس میں انٹرویو ضم. اے میرے دوست ، مجھے بتاو کہ جو شوہر خدا کو احساس کیا جا سکتا ہے ؟ جو دُنیا اور دُنیا میں دونوں رہتا ہیں ۔ نرمل خدا رقیق ہے. اس نے اپنے آپ کے ساتھ ایک شخص کو یکجا ہے کہ اپنے آپ پر ہے.

آپے ہی پ٘ربھُ دیہِ متِ
ہرِ نامُ دھِیائیِۓَ ॥
وڈبھاگی ستِگُرُ مِلےَ
مُکھِ انّم٘رِتُ پائیِۓَ ॥
ہئُمےَ دُبِدھا بِنسِ جاءِ
سہجے سُکھِ سمائیِۓَ ॥
سبھُ آپے آپِ ورتدا
آپے ناءِ لائیِۓَ ॥2॥
منمُکھِ گربِ ن پائِئۄ
اگِیان اِیاݨے ॥
ستِگُر سیوا نا کرہِ
پھِرِ پھِرِ پچھُتاݨے ॥
گربھ جۄنی واسُ پائِدے
گربھے گلِ جاݨے ॥
میرے کرتے ایوےَ بھاودا
منمُکھ بھرماݨے ॥2॥
میرےَ ہرِ پ٘ربھِ لیکھُ لِکھائِیا
دھُرِ مستکِ پۄُرا ॥
ہرِ ہرِ نامُ دھِیائِیا
بھیٹِیا گُرُ سۄُرا ॥
میرا پِتا ماتا ہرِ نامُ ہےَ
ہرِ بنّدھپُ بیِرا ॥
ہرِ ہرِ بخشِ مِلاءِ پ٘ربھ
جنُ نانکُ کیِرا ॥4॥3॥ 17 ॥ 37 ॥
گئُڑی بیَراگݨِ محلا 3॥
ستِگُر تے گِیانُ پائِیا
ہرِ تتُ بیِچارا ॥
متِ ملیِݨ پرگٹُ بھئی
جپِ نامُ مُرارا ॥
سِوِ سکتِ مِٹائیِیا
چۄُکا انّدھِیارا ॥
دھُرِ مستکِ جِن کءُ لِکھِیا
تِن ہرِ نامُ پِیارا ॥1॥
ہرِ کِتُ بِدھِ پائیِۓَ سنّت جنہُ
جِسُ دیکھِ ہءُ جیِوا ॥
ہرِ بِنُ چسا ن جیِوتی
گُر میلِہُ ہرِ رسُ پیِوا ॥1॥ رہاءُ ॥
ہءُ ہرِ گُݨ گاوا نِت ہرِ سُݨی
ہرِ ہرِ گتِ کیِنی ॥
ہرِ رسُ گُر تے پائِیا
میرا منُ تنُ لیِنی ॥
دھنُ دھنُ گُرُ ست پُرکھُ ہےَ
جِنِ بھگتِ ہرِ دیِنی ॥
جِسُ گُر تے ہرِ پائِیا
سۄ گُرُ ہم کیِنی ॥2॥
گُݨداتا ہرِ راءِ ہےَ
ہم اوگݨِیارے ॥
پاپی پاتھر ڈۄُبدے
گُرمتِ ہرِ تارے ॥
تۄُنّ گُݨداتا نِرملا
ہم اوگݨِیارے ॥
ہرِ سرݨاگتِ راکھِ لیہُ
مۄُڑ مُگدھ نِستارے ॥3॥
سہجُ اننّدُ سدا گُرمتی
ہرِ ہرِ منِ دھِیائِیا ॥
سجݨُ ہرِ پ٘ربھُ پائِیا
گھرِ سۄہِلا گائِیا ॥
ہرِ دئِیا دھارِ پ٘ربھ بینتی
ہرِ ہرِ چیتائِیا ॥
جن نانکُ منّگےَ دھۄُڑِ تِن
جِن ستِگُرُ پائِیا ॥4॥4॥ 18 ॥ 38 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 4 چئُتھا چئُپدے
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
پنّڈِتُ ساست سِم٘رِتِ پڑِیا ॥
جۄگی گۄرکھُ گۄرکھُ کرِیا ॥
مےَ مۄُرکھ ہرِ ہرِ جپُ پڑِیا ॥1॥
نا جانا کِیا گتِ رام ہماری ۔ ॥
ہرِ بھجُ من میرے
ترُ بھئُجلُ تۄُ تاری ॥1॥ رہاءُ ॥

اے خُدا ، جس پر تُو نے اپنے نام پر حکمت یاد کی ہے ۔ خوش قسمتی سے ، جو حقیقی گرو سے ملتا ہے ، نام کے امرت ذائقہ کرتا ہےاُس کی انانیت اور دوگانگی خاتمہ ہیں اور وہ انٹرویو نعمتوں میں رہتا ہے ۔وہ خود وسعت ہے ۔ وہ خود ہمیں نام سے رابطہ کرتا ہے ۔وہ اپنی تکبر کرنے والے شخص کو خدا کا احساس نہیں کرتے ۔ وہ جاہل اور احمقانہ ہیں ۔وہ سچے گرو کی تعلیمات پر عمل نہیں کرتے ، اور آخر میں ، وہ افسوس اور پھر سے زیادہ توبہ کرتے ہیںوہ شرح پیدائش اور اموات کے ادوار میں پھنس گئے ہیں اور بالآخر وہ روحانی طور پر پیدائش اور موت کے ان دوروں میں پھنسے ہوئے ہیں. یہ میرے خالق کو خوش کرتا ہے کہ یہ خود چاہتے ہیں شک میں کھو رہے ہیںایک جو میرے کامل خدا کی طرف سے کامل قسمت کے ساتھ مقرر کیا گیا تھا ، وہ بہادر گرو کے ساتھ ملاقات اور ہمیشہ خدا کے نام پر یاد سے محبت کرتا تھااب ، خُدا کا نام میرے باپ ، ماں ، بھائی اور رشتہ دار ہے ۔اے خُدا ، براہِ کرم رحمت عطا فرما اور اپنے حلیم نانک کو اپنے ساتھ متحد کر ۔ حقیقی گرو سے الہی علم حاصل, میں نے خدا کے فضائل پر غور. خُدا کے نام پر مراقبہ کرکے ساتھ آلودہ عقل کا روشن خیال تھا ۔خدا مایا اور جہالت کی تاریکی کے اثر و رسوخ کو مٹا دیا ۔خدا کا نام صرف ان لوگوں کے لئے خوش ہے ، جو اس سے قبل مقرر کیا گیا ہے. “اے مقدسین ، براہِ کرم مجھے بتاؤ کہ میں خُدا کو کیسے سمجھ سکتا ہوں ، آئینہ جس کو میں رُوحانی طور پر زندہ کرتا ہوں ۔خدا کے بغیر ، میں روحانی طور پر بھی ایک فوری طور پر زندہ نہیں رہ سکتا. براہِ کرم مجھے گرو کے ساتھ متحد کر ، تاکہ میں خُدا کے نام کے آب کا حصہ ہوں ۔ میں روزانہ خدا کی حمد اور گانا سنتا ہوں ۔ خُدا نے مجھے غلامی نابالغ ہے ۔ میں نے گرو سے نام کا جوہر پایا ہے ۔ اب میرا من اور جسم اس وقت ضم ہے ۔مبارک ہے وہ گرو جو خدا کی عبادت و پرستش کا تحفہ عطا کرتا ہے ۔میں نے اپنے آپ کو ایسے گرو میں وقف کر دیا ہے جس کے وسیلہ سے میں نے خدا کو محسوس کیا ۔خود مختار خدا عطا کی ہے ، لیکن ہم سب سے بھرا ہوا ہےہم گنہگار اس دنیا میں کے سمندر میں پتھر کی طرح ڈوب جاتے ہیں ۔ گرو کی تعلیمات کے ذریعے ، خدا نے ہمیں بھر میں گھاٹ. اے خُدا ، آپ فضائل کے نرمل عطا ہیں ، لیکن ہم سے بھرے ہیں ۔اے خُدا ، ہم نے تیری پناہ میں داخل کیا ہے ۔ براہِ کرم ہمیں سے بچا ، جیسا کہ تُو نے بے وقوف لوگوں کو غلامی نابالغ ہے ۔جو لوگ اپنے ذہن میں گرو کی تعلیمات کے ذریعے خدا پر مراقبہ ہیں وہ ابدی اور خوشی حاصل کر چکے ہیں ۔انہوں نے خدا ، ایک سچے دوست کو محسوس کیا ہے اور اس طرح کی خوشی سے لطف اندوز کر رہے ہیں ، کیونکہ خوشی کا ایک گانا ان کے دلوں میں گایا جا رہا ہےاے خُدا ، یہ میری دُعا آپ سے پہلے ہے ۔ براہِ کرم رحم کو ظاہر کر اور مجھے ہمیشہ سے پیار عقیدت کے ساتھ یاد کر ۔ نانک جنم لیتا ان لوگوں کی سب سے زیادہ شائستہ خدمت کے لئے جو حقیقی گرو سے ملاقات کی ہے. ایک ابدی خدا ، جو کہ سچے گرو کے فضل سے احساس ہوا: پنڈت الزماں اور سامراتیس (ہندو مقدس صحائف) کو بھی ۔ یوگی اپنے روحانی رہنما کے نام پر یاد, گوراکہ مجھے جاہل, صرف نام پر مراقبہ کرنے کے لئے میرے گرو سے سیکھا ہےاے خُدا ، میں نہیں جانتا کہ میری حتمی قسمت کیا ہو گا ۔اے میرے ذہن میں ، خدا کے نام سے محبت کرنے والی عقیدت کے ساتھ اور کے خوفناک دنیا سمندر بھر میں تیر پر غور.

سنّنِیاسی بِبھۄُت لاءِ دیہ سواری ॥
پر ت٘رِء تِیاگُ کری ب٘رہمچاری ॥
مےَ مۄُرکھ ہرِ آس تُماری ॥2॥
کھت٘ری کرم کرے سۄُرتݨُ پاوےَ ॥
سۄُدُ ویَسُ پر کِرتِ کماوےَ ॥
مےَ مۄُرکھ ہرِ نامُ چھڈاوےَ ॥3॥
سبھ تیری س٘رِسٹِ تۄُنّ آپِ رہِیا سمائی ॥
گُرمُکھِ نانک دے وڈِیائی ॥
مےَ انّدھُلے ہرِ ٹیک ٹِکائی ॥4॥1॥ 39 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 4॥
نِرگُݨ کتھا کتھا ہےَ ہرِ کی ॥
بھجُ مِلِ سادھۄُ سنّگتِ جن کی ॥
ترُ بھئُجلُ اکتھ کتھا سُنِ ہرِ کی ॥1॥
گۄبِنّد ستسنّگتِ میلاءِ ॥
ہرِ رسُ رسنا رام گُن گاءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
جۄ جن دھِیاوہِ ہرِ ہرِ ناما ॥
تِن داسنِ داس کرہُ ہم راما ۔ ॥
جن کی سیوا اُتم کاما ॥2॥
جۄ ہرِ کی ہرِ کتھا سُݨاوےَ ॥
سۄ جنُ ہمرےَ منِ چِتِ بھاوےَ ॥
جن پگ ریݨُ وڈبھاگی پاوےَ ॥3॥
سنّت جن سِءُ پ٘ریِتِ بنِ آئی ॥
جِن کءُ لِکھتُ لِکھِیا دھُرِ پائی ॥
تے جن نانک نامِ سمائی ॥4॥2॥ 40 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 4॥
ماتا پ٘ریِتِ کرے پُتُ کھاءِ ॥
میِنے پ٘ریِتِ بھئی جلِ ناءِ ॥
ستِگُر پ٘ریِتِ گُرسِکھ مُکھِ پاءِ ॥1॥
تے ہرِ جن ہرِ میلہُ ہم پِیارے ॥
جِن مِلِیا دُکھ جاہِ ہمارے ॥1॥ رہاءُ ॥
جِءُ مِلِ بچھرے گئۄُ پ٘ریِتِ لگاوےَ ॥
کامنِ پ٘ریِتِ جا پِرُ گھرِ آوےَ ॥
ہرِ جن پ٘ریِتِ جا ہرِ جسُ گاوےَ ॥2॥
سارِنّگ پ٘ریِتِ بسےَ جل دھارا ॥
نرپتِ پ٘ریِتِ مائِیا دیکھِ پسارا ॥
ہرِ جن پ٘ریِتِ جپےَ نِرنّکارا ॥3॥
نر پ٘راݨی پ٘ریِتِ مائِیا دھنُ کھاٹے ॥
گُرسِکھ پ٘ریِتِ گُرُ مِلےَ گلاٹے ॥
جن نانک پ٘ریِتِ سادھ پگ چاٹے ॥4॥3॥ 41 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 4॥
بھیِکھک پ٘ریِتِ بھیِکھ پ٘ربھ پاءِ ॥
بھۄُکھے پ٘ریِتِ ہۄوےَ انّنُ کھاءِ ॥
گُرسِکھ پ٘ریِتِ گُر مِلِ آگھاءِ ॥1॥
ہرِ درسنُ دیہُ ہرِ آس تُماری ॥
کرِ کِرپا لۄچ پۄُرِ ہماری ॥1॥ رہاءُ ॥
چکوی پ٘ریِتِ سۄُرجُ مُکھِ لاگےَ ॥
مِلےَ پِیارے سبھ دُکھ تِیاگےَ ॥
گُرسِکھ پ٘ریِتِ گُرۄُ مُکھِ لاگےَ ॥2॥
بچھرے پ٘ریِتِ کھیِرُ مُکھِ کھاءِ ॥
ہِردےَ بِگسےَ دیکھےَ ماءِ ॥
گُرسِکھ پ٘ریِتِ گُرۄُ مُکھِ لاءِ ॥3॥
ہۄرُ سبھ پ٘ریِتِ مائِیا مُہُ کاچا ॥
بِنسِ جاءِ کۄُرا کچُ پاچا ॥
جن نانک پ٘ریِتِ ت٘رِپتِ گُرُ ساچا ॥4॥4॥ 42 ॥
ساننیاسا (ایکانتواسی) اس کے جسم کو راکھ سے سمیارانگ کر کے اس کی لاش انہوں نے تمام خواتین کے ساتھ رابطے سے بچتے کی طرف سے تجرد کی مشقیں. اے خدا ، میں جاہل ہوں اور میں نے اپنی امیدوں کو آپ میں رکھا ہے ۔ کشتری (یودقا) اعمال دلیری ، اور اس کی بہادری کے لئے تسلیم کیا جاتا ہےشودروں (کلاس) اور وایسہ (بزنس کلاس) یہ سوچتے ہیں کہ ان کی نجات دوسروں کی خدمت میں مضمر ہےمیں جاہل ہوں لیکن میں اس بات پر یقین رکھتا ہوں کہ یہ خدا کے نام پر مراقبہ ہے ، جو مجھ کے سمندر سے بچائے گااے خُدا ، ساری کائنات تیری ہے ۔ آپ خود اس میں ویاپت ہیں اے نانک ، خدا اپنے نام کے جلال کو گرو کے پیروکار پر برکت دیتا ہے ۔میں اندھے (جاہل) ، آپ میں اپنی مدد کو دوبارہ پیش کر رہا ہوں ۔ خُدا کی حمد کے شاندار الفاظ مایا کی تین خصلتوں سے پرے ہیں ۔مقدس جماعت میں شمولیت اور محبت نام پر مراقبہ. خدا کی تعریف کو سننے سے ، جو بیان نہیں کیا جا سکتا کے اس خوفناک دنیاوی سمندر میں تیراے ‘ کائنات کے خُدا ، براہِ کرم مجھے پاک جماعت کے ساتھ متحد کر ، تاکہ میں تیری حمد کے ساتھ تیرے نام کے آب سے لطف اندوز ہو سکوں ۔ اے خُدا ، اُن کے لیے جو محبت کرنے والے ہیں ، جو کہ پیار کے نام پر مراقبہ کرتے ہیں ، مجھے اپنے عقیدت مند ہونے والے لوگوں کے حلیم بندے بنانے کے لیے حتمی اچھائی کا کام ہے ۔جو مجھ پر خدا کی تعریف کرتا ہے وہ الزماں میرے لئے بہت خوش ہے ۔یہ ایک بہت ہی خوش قسمت شخص ہے جو ایک سچے دین کی شائستہ سروس سے نوازا جاتا ہے. || 3 | صرف وہ ساینٹل لوگوں کی محبت کے ساتھ حواریوں ہیں ، جو اس طرح کی مقرر کردہ قسمت سے نوازا جاتا ہےاے ‘ نانک, صرف اس طرح کے عقیدت خدا کے نام میں ضم. جیسا کہ ماں اس کے بیٹے کو مزیدار کھانا کھاتے دیکھنے کے لئے محبت کرتا ہےجیسا کہ مچھلی سے محبت کرتا ہے اور خوشی محسوس ہوتا ہے جب یہ آزادانہ طور پر پانی میں ہےاسی طرح حقیقی گرو کی خوشی اس کے شاگرد کو الہی لفظ فراہم کرنے میں مضمر ہے ۔ اے میرے پیارے خُدا ، مجھے اپنے آپ کے ساتھ ملنے والے لوگوں کے ساتھ متحد کر ، اُن کے ساتھ ملاقات ، جو میری تمام تر گمراہ ہو سکتی ہیں ۔ جیسا کہ گائے اس کے بچھڑا سے محبت کرتا ہے ، اور دلہن اس نے گھر واپس جب اس کے شوہر کے لئے اس کی محبت کو ظاہر کرتا ہے ، اسی طرح خدا کے دیوتا محبت اور خوشی کے ساتھ حواریوں محسوس ہوتا ہے جب وہ خدا کی تعریف کرتا ہے. || 2 | ایک گانا پرندوں کے لئے سب سے زیادہ خوشگوار چیز ہے جب بارش آسمان سے ایک ندی کی طرح آتا ہےبادشاہ ڈسپلے پر ان کے مال کو دیکھنے کے لئے محبت کرتا ہےخدا کا فروتن حلیم خُدا کو کم خدا پر مراقبہ کرنے سے محبت کرتا ہے ۔ہر انسان دولت اور جائداد حاصل کرنے کے لئے محبت کرتا ہے. (شاگرد) گرو کی تعلیمات کو قبول کرنے سے محبت کرتا ہےاے ‘ نانک ، ایک خدا کے ساتھ مقدس کی خدمت عاجزی سے محبت کرتا ہے. ایک قسم شخص کے ساتھ بھوکا شخص کھانا کھانے سے محبت کرتا ہے سے خیرات حاصل کرنے کے لئے محبت کرتا ہےشاگرد گرو سے ملنے اور مایا کی طرف ترپت محسوس کرنے سے محبت کرتا ہے ۔اے خُدا ، براہِ کرم مجھے اپنے دل میں محسوس کر ۔ میں اپنی تمام امیدوں کو آپ پر پن کرتا ہوں ۔براہِ کرم اپنی رحمت کو ظاہر کر ، اور میری چاہت کو پورا کر ۔نغمہ پرندوں کو اس کے چہرے کے سامنے میں سورج کی چمک دیکھنے کے لئے محبت کرتا ہے ، کیونکہ ، اس کے محبوب میٹ سے ملنے پر ، وہ اس کی ہلاکی کو تاخیر ہےگرو کے شاگرد اس گرو کی نظر کو دیکھ کر پیار کرتے ہیں ۔بچھڑا اس کی ماں کا دودھ چوستے سے محبت کرتا ہےبچھڑا کا دل اس کی ماں کو دیکھنے پر پھول ہے ۔گرو کے شاگرد اس گرو کی نظر کو دیکھ کر پیار کرتے ہیں ۔مایا کے لئے تمام دیگر محبت اور جذباتی منسلکات جھوٹے ہیں وہ دور ، جھوٹے اور عارضی سجاوٹ کی طرح ، منتقل کرے گا. اے ‘ نانک ، جو سچا گرو سے ملتا ہے وہ واقعی خوش ہو جاتا ہے کیونکہ گرو سے ملنے کی اطمینان کی وجہ سے.

گئُڑی گُیاریری محلا 4॥
ستِگُر سیوا سپھل ہےَ بݨی ॥
جِتُ مِلِ
ہرِ نامُ دھِیائِیا ہرِ دھݨی ॥
جِن ہرِ جپِیا تِن پیِچھےَ چھۄُٹی گھݨی ॥1॥
گُرسِکھ ہرِ بۄلہُ میرے بھائی ۔ ॥
ہرِ بۄلت سبھ پاپ لہِ جائی ॥1॥ رہاءُ ॥
جب گُرُ مِلِیا تب منُ وسِ آئِیا ॥
دھاوت پنّچ رہے ہرِ دھِیائِیا ॥
اندِنُ نگری ہرِ گُݨ گائِیا ॥2॥
ستِگُر پگ دھۄُرِ جِنا مُکھِ لائی ॥
تِن کۄُڑ تِیاگے ہرِ لِو لائی ॥
تے ہرِ درگہ مُکھ اۄُجل بھائی ॥3॥
گُرُ سیوا آپِ ہرِ بھاوےَ ॥
ک٘رِسنُ بلبھد٘رُ گُر پگ لگِ دھِیاوےَ ॥
نانک گُرمُکھِ ہرِ آپِ تراوےَ ॥4॥5॥ 43 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 4॥
ہرِ آپے جۄگی ڈنّڈادھاری ॥
ہرِ آپے روِ رہِیا بنواری ॥
ہرِ آپے تپُ تاپےَ لاءِ تاری ॥1॥
ایَسا میرا رامُ رہِیا بھرپۄُرِ ॥
نِکٹِ وسےَ ناہی ہرِ دۄُرِ ॥1॥ رہاءُ ॥
ہرِ آپے سبدُ سُرتِ دھُنِ آپے ॥
ہرِ آپے ویکھےَ وِگسےَ آپے ॥
ہرِ آپِ جپاءِ آپے ہرِ جاپے ॥2॥
ہرِ آپے سارِنّگ انّم٘رِتدھارا ॥
ہرِ انّم٘رِتُ آپِ پیِیاوݨہارا ॥
ہرِ آپِ کرے آپے نِستارا ॥3॥
ہرِ آپے بیڑی تُلہا تارا ॥
ہرِ آپے گُرمتی نِستارا ॥
ہرِ آپے نانک پاوےَ پارا ॥4॥6॥ 44 ॥
گئُڑی بیَراگݨِ محلا 4 ॥
ساہُ ہمارا تۄُنّ دھݨی
جیَسی تۄُنّ راسِ دیہِ تیَسی ہم لیہِ ॥
ہرِ نامُ وݨنّجہ رنّگ سِءُ
جے آپِ دئِیالُ ہۄءِ دیہِ ॥1॥
ہم وݨجارے رام کے ॥
ہرِ وݨجُ کراوےَ دے راسِ رے ॥1॥ رہاءُ ॥
لاہا ہرِ بھگتِ دھنُ کھٹِیا
ہرِ سچے ساہ منِ بھائِیا ॥
ہرِ جپِ ہرِ وکھرُ لدِیا
جمُ جاگاتی نیڑِ ن آئِیا ॥2॥
ہۄرُ وݨجُ کرہِ واپاریِۓ
اننّتُ ترنّگی دُکھُ مائِیا ॥
اۄءِ جیہےَ وݨجِ ہرِ لائِیا
پھلُ تیہا تِن پائِیا ॥3॥
ہرِ ہرِ وݨجُ سۄ جنُ کرے
جِسُ ک٘رِپالُ ہۄءِ پ٘ربھُ دیئی ॥
جن نانک ساہُ ہرِ سیوِیا
پھِرِ لیکھا مۄُلِ ن لیئی ॥4॥1॥7॥ 45 ॥
گئُڑی بیَراگݨِ محلا 4॥
جِءُ جننی گربھُ پالتی
سُت کی کرِ آسا ॥
وڈا ہۄءِ دھنُ کھاٹِ دےءِ
کرِ بھۄگ بِلاسا ॥
تِءُ ہرِ جن پ٘ریِتِ ہرِ راکھدا
دے آپِ ہتھاسا ॥1॥
سچی گرو کی تعلیمات ثمر آور بن جاتی ہیں ۔اس لئے کہ اس کے وسیلہ سے ایک یاد خدا کے نام پر ایک ہے ۔بہت سے لوگ نام پر مراقبہ کرنے والوں کے ساتھ ساتھ سے بچا رہے ہیں. || 1 | اے ‘ میرے برادرانہ کے شاگرد ، پیار خدا کے نام پر مراقبہ کرتے ہیں ۔خدا کے نام پر مراقبہ ، تمام گناہ دور دھویا جاتا ہے. جب ایک گرو کی تعلیمات پر عمل کیا جاتا ہے تو اس کے ذہن میں کوئی اعتراض قابو میں آتا ہے ۔ خدا پر مراقبہ کرتے ہوئے, ایک کی پانچ فیکلٹیز (نظر, آواز, بو, چھو, اور ذائقہ) برائی کے محرکات کے بعد چلنا بند, اور روح, جسم کے مالک, ہمیشہ خدا کی تعریف گاتی. || 2 | وہ لوگ جنہوں نے مکمل ایمان اور احترام کے ساتھ گرو کی تعلیمات پر عمل کیا ہے ، ان کے تمام جھوٹ منحرف اور خدا کی محبت کو خود باخبراے میرے بھائی ، ایسے افراد خدا کی عدالت میں عزت پاتے ہیں ۔ || 3 | ان کی تعلیمات کی پیروی کی طرف سے گرو کی خدمت خود خدا کے لئے خوش ہےیہاں تک کہ کرشن ، اور بالبھدرا مراقبہ ان کے گرو کی تعلیمات کے ذریعے خدا پر. اے ‘ نانک ، یہ گرو کے ذریعے ہے کہ خدا خود کو کے اس دنیاوی سمندر میں تیر کرنے کے لئے ایک شخص کی مدد کرتا ہے. خدا خود یوگی ہے, جو اتھارٹی کے عملے کو بڑیخدا خود اس دنیاوی جنگل کے مالک کے طور پر وسعت ہےخدا خود کو شدید خود کو منظم مراقبہ کی مشق ہے. یہ میرا خدا ہے جو ہر جگہ وسعت ہے ۔ خُدا تمام مخلوقات کے قریب رہتا ہے اور کہیں سے دُور نہیں ہوتا ۔ || 1 | | توقف | خدا خود الہٰی کلام ہے ، خود آگاہی ہے ، اور خود اپنی موسیقی کو دیکھتے ہیں خدا خود اس کی تخلیق پر گھڑیاں اور اس آئینہ خوشی محسوس ہوتا ہےخدا خود یاد کلام پر ، اور دوسروں کو مراقبہ کے لئے حوصلہ افزائی. || 2 | | خدا خود کویل ہے ، خود امرت کی بارش خُدا خود مہکنا امرت ہے ۔ وہ خود اسے پینے کی طرف لے جاتا ہےخدا خود مخلوق پیدا کرتا ہے اور وہ خود کے سمندر بھر میں ان کو گھاٹ. || 3 | خدا خود کشتی ، بیڑا اور ڈانڈی ہے. خُدا خود سے ہمیں گرو کی تعلیمات سے بچاتا ہے اے نانک ، خدا خود ہمیں کے سمندر سے بھر لے جاتا ہے. اے خُدا ، تُو ہمارا آقا ہے اور ہم صرف اُس چیز کو حاصل کرتے ہیں جو آپ ہمیں دیتے ہیں ۔ہم خُدا کے نام کی دولت میں پیار کریں گے ، اگر تُو شفیق ہو اور ہمیں یہ دولت عطا کرے ۔ || 1 | ہم نے خدا کی طرف سے بھیجے گئے تاجروں ہیں اے بھائی ، ہمیں نام کا دارالحکومت دے کر ، وہ ہمیں اس میں سودا کرتا ہے ۔ || 1 | | توقف | | اس زندگی میں جو شخص نے خدا کی عقیدت کی عبادت کا فائدہ حاصل کیا ہے وہ خدا کے لئے خوشگوار ہے ، سچا ماسٹرایک خدا کے نام پر مراقبہ کی طرف سے وہ شخص کی دولت کو بھی موت کے بھوت کی طرف سے پریشانی نہیں ہے ، | | 2 | وہ تاجر جو دوسرے دنیاوی تجارت میں تجارت کرتے ہیں ، مایا کی لامتناہی لہروں میں پھنس جاتے ہیں اور درد اور غم برداشت کرتے ہیں ۔ کسی بھی کاروبار میں خدا نے ان کو حکم دیا ہے ، انہوں نے اس کے مطابق انعام حاصل کیا ہے. || 3 | | صرف وہ شخص جو خدا کے نام کے دارالحکومت میں ہے ، جس پر خدا رحم کرتا ہے اور نام کی دولت کو رکھے ہے”اے نانک ، جو محبت رکھتا ہے وہ خدا کی عقیدت کی عبادت کرتا ہے ، حقیقی مالک نے کبھی بھی اس کی ذمہ دار نہیں کی ہے. ماں نے آبیاری میں جنین کو ایک بیٹا (صحتمند فرزند) کی امید کی ، جو اس میں اضافہ ہو گا اور دنیاوی پلیاسورس سے لطف اندوز ہو گی ۔صرف اسی طرح ، خدا کے فروتن بندوں اس سے محبت کرتے ہیں ، جو ان کے لئے ان کی مدد کے ہاتھ توسیع.

میرے رام مےَ مۄُرکھ
ہرِ راکھُ میرے گُسئیِیا ۔ ॥
جن کی اُپما تُجھہِ وڈئیِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
منّدرِ گھرِ آننّدُ ہرِ
ہرِ جسُ منِ بھاوےَ ॥
سبھ رس میِٹھے مُکھِ لگہِ
جا ہرِ گُݨ گاوےَ ॥
ہرِ جنُ پروارُ سدھارُ ہےَ
اِکیِہ کُلی سبھُ جگتُ چھڈاوےَ ॥2॥
جۄ کِچھُ کیِیا سۄ ہرِ کیِیا
ہرِ کی وڈِیائی ॥
ہرِ جیء تیرے تۄُنّ ورتدا
ہرِ پۄُج کرائی ॥
ہرِ بھگتِ بھنّڈار لہائِدا
آپے ورتائی ॥3॥
لالا ہاٹِ وِہاجھِیا
کِیا تِسُ چتُرائی ۔ ॥
جے راجِ بہالے تا ہرِ غُلامُ
گھاسی کءُ ہرِ نامُ کڈھائی ॥
جنُ نانکُ ہرِ کا داسُ ہےَ
ہرِ کی وڈِیائی ॥4॥2॥8॥ 46 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 4॥
کِرساݨی کِرساݨُ کرے
لۄچےَ جیءُ لاءِ ॥
ہلُ جۄتےَ اُدمُ کرے
میرا پُتُ دھی کھاءِ ॥
تِءُ ہرِ جنُ ہرِ ہرِ جپُ کرے
ہرِ انّتِ چھڈاءِ ॥1॥
مےَ مۄُرکھ کی گتِ کیِجےَ
میرے رام ۔ ॥
گُر ستِگُر سیوا ہرِ
لاءِ ہم کام ॥1॥ رہاءُ ॥
لےَ تُرے سئُداگری
سئُداگرُ دھاوےَ ॥
دھنُ کھٹےَ آسا کرےَ
مائِیا مۄہُ ودھاوےَ ॥
تِءُ ہرِ جنُ ہرِ ہرِ بۄلتا
ہرِ بۄلِ سُکھُ پاوےَ ॥2॥
بِکھُ سنّچےَ ہٹواݨیِیا
بہِ ہاٹِ کماءِ ॥
مۄہ جھۄُٹھُ پسارا جھۄُٹھ کا
جھۄُٹھے لپٹاءِ ॥
تِءُ ہرِ جنِ ہرِ دھنُ سنّچِیا
ہرِ کھرچُ لےَ جاءِ ॥3॥
اِہُ مائِیا مۄہ کُٹنّبُ ہےَ
بھاءِ دۄُجےَ پھاس ॥
گُرمتی سۄ جنُ ترےَ
جۄ داسنِ داس ॥
جنِ نانکِ نامُ دھِیائِیا
گُرمُکھِ پرگاس ॥4॥3॥9॥ 47 ॥
گئُڑی بیَراگݨِ محلا 4॥
نِت دِنسُ راتِ لالچُ کرے
بھرمےَ بھرمائِیا ॥
ویگارِ پھِرےَ ویگاریِیا
سِرِ بھارُ اُٹھائِیا ॥
جۄ گُر کی جنُ سیوا کرے
سۄ گھر کےَ کنّمِ ہرِ لائِیا ॥1॥
میرے رام تۄڑِ بنّدھن مائِیا
گھر کےَ کنّمِ لاءِ ॥
نِت ہرِ گُݨ گاوہ
ہرِ نامِ سماءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
نرُ پ٘راݨی چاکری کرے
نرپتِ راجے ارتھِ سبھ مائِیا ॥
کےَ بنّدھےَ کےَ ڈانِ لےءِ
کےَ نرپتِ مرِ جائِیا ॥
دھنّنُ دھنُ سیوا سپھل ستِگُرۄُ کی
جِتُ ہرِ ہرِ نامُ جپِ ہرِ سُکھُ پائِیا ॥2॥
نِت سئُدا سۄُدُ کیِچےَ بہُ بھاتِ کرِ
مائِیا کےَ تائی ॥
جا لاہا دےءِ تا سُکھُ منے
تۄٹےَ مرِ جائی ॥
جۄ گُݨ ساجھی گُر سِءُ کرے
نِت نِت سُکھُ پائی ॥3॥

اے میرے خدا ، میں جاہل ہوں ، براہ مہربانی مجھے اپنی پناہ میں رکھ ۔ آپ کی عظمت کی تعریف آپ کی اپنی شاندار عظمت ہے. || 1 | | توقف | | ایک جو خدا کی تعریف کو پڑھنا پسند کرتا ہے ہمیشہ نعمتوں میں تنبہیہ ہے.
جب کوئی محبت کے ساتھ خدا کی تعریف کرتا ہے ، ایک محسوس ہوتا ہے کہ وہ تمام میٹھی نزیکوں سے لطف اندوز ہو رہا ہے. خدا کا ایک ساتھی صرف اپنے تمام ساتھیوں کو سے بچانے میں مدد کرتا ہے ، بلکہ پوری دنیا کو بھی بچاتا ہے. || 2 | | جو کچھ بھی دنیا میں دیکھا جاتا ہے وہ ہے جو خدا نے کیا ہے اور یہ خدا کا جلال ہے. اے خُدا ، تمام مخلوقات تیری مخلوق ہیں ۔ آپ ان میں وسعت ہیں اور آپ انہیں اپنی عقیدت کی عبادت کے لئے حوصلہ افزائی کرتے ہیں. خدا اپنے آپ کو رکھے کی عبادت کرتا ہے ۔ || 3 | | اگر ایک غلام بازار سے خریدا گیا ہے تو اس کے چالاکی میں سے کوئی بھی ماسٹر سے پہلے کام نہیں کر سکتا ۔ خدا نے اپنے حقیقی خادم ایک بادشاہ ہوتا ہے یہاں تک کہ اگر ، وہ اب بھی خدا کے خادم رہتا ہے. اگر وہ اپنا کمگال بنا دیتا ہے تو وہ ابھی بھی اپنا نام یوٹارس ہے ۔ نانک خُدا کا فروتن اور اُس کے جلال پر ظاہر ہوتا ہے ۔ ایک کسان کھیتی باڑی کرتا ہے, اور اپنے دل اور روح کو ان کے کام میں رکھتا ہے. انہوں نے کہا کہ وہ اپنے خاندان کو کھانا کھلانا کر سکتے ہیں تاکہ کھیتوں کو جوت کرنے کے لئے مشکل کام کرتا ہے. اِسی طرح ، خُدا کا یاد نام پر ہے تاکہ خُدا اُس کو موت کے شیاطین سے آزاد کرے ۔ || 1 | | اے میرے خدا ، میں جاہل ہوں ، براہ مہربانی مجھے نجات دے ۔
اے خُدا ، مجھے اپنی تعلیمات کی پیروی کرکے حقیقی گرو کی خدمت کر ۔ || 1 | | توقف | | گھوڑوں کی تجارت کے ساتھ لوڈنگ ، ایک ٹریڈر کاروبار کرنے کے لئے باہر جاتا ہے. وہ دولت کماتا ہے ، زیادہ دولت کی امید رکھتا ہے اور اس طرح اپنی دنیاوی دولت کے ساتھ اپنے تعلق کو بڑھا دیتا ہے ۔ اِسی طرح خُدا کا یوٹارس خُدا کے نام کو دوبارہ اور دوبارہ اور وغیرہ سے خُدا کا نام سچا سکون حاصل کرتا ہے ۔ طرف سے فریب یا لالچ کی طرف سے دنیاوی مال ایک زہر کی طرح ہے. مایا کا یہ منسلکہ اور ڈسپلے کچھ بھی غلط نہیں ہے اور وہ باطل میں مصروف رہے ہے ۔ اسی طرح ، خدا کا عالم خدا کے نام کی دولت حاصل کرنے پر رکھتا ہے ، وہ اگلے دنیا میں اس کے سفر پر اس کے ساتھ ساتھ یہ دولت لیتا ہے. || 3 | | دنیاوی دولت اور خاندان کے لئے یہ تعلق ایک الجھیڑا کی مانند ہے جو ہمیں دوگانگی کے پھسری میں پکڑ جاتی ہے ۔ صرف وہی شخص جو کے دنیاوی سمندر میں ہے جو گرو کی تعلیمات کو پیروی کرتا ہے اور خُدا کے کفر کا فروتن بندہ بن جاتا ہے ۔ گرو کی تعلیمات کے بعد ، نانک نے نام پر مراقبہ محبت کی ہے اور روحانی طور پر روشن خیال کیا گیا ہے ایک دن اور رات کو مایا کے لئے لالچ کی طرف سے پاگل اور برم کی طرف سے بہک رہتا ہے ، ایک مجبور مزدور کی طرح ہے ادا کرنے کے بغیر اس کے سر پر بوجھ لے. لیکن جو شخص اپنی تعلیمات کی پیروی کر کے گرو کی خدمت کرتا ہے ، خدا نے اسے اپنے نام پر مراقبہ کرنے کے لئے تفویض کیا ہے ، جو اس کا حقیقی کام ہے ۔ || 1 | | اے خُدا ، ہمارے مایا کے بارے میں ہمارے بانڈز کو کر اور ہمیں عقیدت کی عبادت کے حقیقی کام پر رکھ ۔
تو وہ نام باخبر ہے ، ہم ہمیشہ آپ کی تعریف گاتے ہیں. صرف اس کے لئے ایک بشر بادشاہ کے لئے کام کرتا ہے ۔ کئی بار اس کے لئے کسی بھی وجہ سے اس ناخوش, اس جیل میں قید یا جرمانہ عائد. کبھی کبھار خود کو فوت ہو جاتا ہے اور اس شخص کی خدمت ضائع ہو جاتی ہے ۔ مُبارک اور ثمر آور سچی گرو کی خدمت ہے ۔ اِس خدمت کے وسیلہ سے خُدا کے نام پر ایک یاد ہے اور وہ خوشی حاصل کرتا ہے ۔ || 2 | | ہر روز ، ایک مختلف قسم کے کاروبار میں دنیاوی دولت حاصل کرنے کے لئے میں داخل ہوتا ہے ۔ اگر یہ کاروبار منافع بخش لاتا ہے تو ایک خوش محسوس ہوتا ہے ، لیکن اس کا دل ٹوٹ جاتا ہے ۔ دوسری طرف ، جب ایک گرو کی کمپنی میں خدا کی تعریف کرتا ہے ، ایک دیرپا امن ملتا ہے. || 3 |

جِتنی بھۄُکھ ان رس ساد ہےَ تِتنی بھۄُکھ پھِرِ لاگےَ ॥
جِسُ ہرِ آپِ ک٘رِپا کرے سۄ ویچے سِرُ گُر آگےَ ॥
جن نانک ہرِ رسِ ت٘رِپتِیا پھِرِ بھۄُکھ ن لاگےَ ॥4॥4॥ 10 ॥ 48 ॥
گئُڑی بیَراگݨِ محلا 4॥
ہمرےَ منِ چِتِ ہرِ آس نِت کِءُ دیکھا ہرِ درسُ تُمارا ॥
جِنِ پ٘ریِتِ لائی سۄ جاݨتا ہمرےَ منِ چِتِ ہرِ بہُتُ پِیارا ॥
ہءُ قُربانی گُر آپݨے جِنِ وِچھُڑِیا میلِیا میرا سِرجنہارا ॥1॥
میرے رام ہم پاپی سرݨِ پرے ہرِ دُیارِ ॥
متُ نِرگُݨ ہم میلےَ کبہۄُنّ اپُنی کِرپا دھارِ ॥1॥ رہاءُ ॥
ہمرے اوگُݨ بہُتُ بہُتُ ہےَ بہُ بار بار ہرِ گݨت ن آوےَ ॥
تۄُنّ گُݨونّتا ہرِ ہرِ دئِیالُ ہرِ آپے بخشِ لیَہِ ہرِ بھاوےَ ॥
ہم اپرادھی راکھے گُر سنّگتی اُپدیسُ دیِئۄ ہرِ نامُ چھڈاوےَ ॥2॥
تُمرے گُݨ کِیا کہا میرے ستِگُرا جب گُرُ بۄلہ تب بِسمُ ہۄءِ جاءِ ॥
ہم جیَسے اپرادھی اورُ کۄئی راکھےَ جیَسے ہم ستِگُرِ راکھِ لیِۓ چھڈاءِ ॥
تۄُنّ گُرُ پِتا تۄُنّہےَ گُرُ ماتا تۄُنّ گُرُ بنّدھپُ میرا سکھا سکھاءِ ॥3॥
جۄ ہمری بِدھِ ہۄتی میرے ستِگُرا سا بِدھِ تُم ہرِ جاݨہُ آپے ॥
ہم رُلتے پھِرتے کۄئی بات ن پۄُچھتا گُر ستِگُر سنّگِ کیِرے ہم تھاپے ॥
دھنّنُ دھنّنُ گُرۄُ نانک جن کیرا جِتُ مِلِۓَ چۄُکے سبھِ سۄگ سنّتاپے ॥4॥5॥ 11 ॥ 49 ॥
گئُڑی بیَراگݨِ محلا 4 ॥
کنّچن ناری مہِ جیءُ لُبھتُ ہےَ مۄہُ میِٹھا مائِیا ॥
گھر منّدر گھۄڑے خُشی منُ ان رسِ لائِیا ॥
ہرِ پ٘ربھُ چِتِ ن آوئی کِءُ چھُٹا میرے ہرِ رائِیا ۔ ॥1॥
میرے رام اِہ نیِچ کرم ہرِ میرے ॥
گُݨونّتا ہرِ ہرِ دئِیالُ کرِ کِرپا بخشِ اوگݨ سبھِ میرے ॥1॥ رہاءُ ॥
کِچھُ رۄُپُ نہی کِچھُ زاتِ ناہی کِچھُ ڈھنّگُ ن میرا ॥
کِیا مُہُ لےَ بۄلہ گُݨ بِہۄُن نامُ جپِیا ن تیرا ॥
ہم پاپی سنّگِ گُر اُبرے پُنّنُ ستِگُر کیرا ॥2॥
سبھُ جیءُ پِنّڈُ مُکھُ نکُ دیِیا ورتݨ کءُ پاݨی ॥
انّنُ کھاݨا کپڑُ پیَنݨُ دیِیا رس انِ بھۄگاݨی ॥
جِنِ دیِۓ سُ چِتِ ن آوئی پسۄُ ہءُ کرِ جاݨی ॥3॥
سبھُ کیِتا تیرا ورتدا تۄُنّ انّترجامی ॥
ہم جنّت وِچارے کِیا کرہ سبھُ کھیلُ تُم سُیامی ۔ ॥
جنُ نانکُ ہاٹِ وِہاجھِیا ہرِ گُلم غُلامی ॥4॥6॥ 12 ॥ 50 ॥

زیادہ تر دنیاوی خوشیوں کا ذائقہ ہے ، زیادہ شدید ترس ان خوشیوں کے لئے محسوس ہوتا ہے. وہ شخص یوگوسلاویہ کو مکمل طور پر ظاہر کرتا ہے ، جس پر خدا رحم کرے ۔ “اے نانک ، وہ شخص خدا کے نام کے آب سے ترپت ہے اور پھر دنیاوی مال کی ترس اسے پھر سے تکلیف نہیں دیتا ۔اے خدا ، میرے ہوش دماغ کے اندر آپ کے لئے مسلسل ترس ہے; میں تیرے بابرکت خواب کو کیسے دیکھ سکتا ہوں ؟جس نے مجھے اس محبت سے حواریوں ہے وہ جانتا ہے کہ خدا میرے ذہن میں بہت عزیز ہے ۔ میں اپنے آپ کو اپنے گرو کو وقف کرتا ہوں جو مجھے اپنے خالق کے ساتھ متحد کرتا ہے جس سے میں الگ کر رہا تھا. || 1 | | اے میرے خُدا ، میں تیرے دروازے پر پناہ کے لیے ایک گنہگار ہوں ، شاید رحم دکھائی دے ، تُو میرے ساتھ تیرے ساتھ ایک گنہگار متحد کر سکتا ہے ۔ || 1 | | توقف | اے خُدا ، میرے گناہ بہت زیادہ ہیں کہ یہ شمار نہیں کیے جا سکتے اور میں دوبارہ اور دوبارہ ان گناہوں کا ارتکاب ختم کر سکتا ہوں ۔اے خُدا ، تُو اپنے فضائل و مہربان کا خزانہ ہے ۔ آپ لوگوں کو معافی دیتے ہیں جب یہ آپ کو خوشخدا نے مجھے گرو کی کمپنی میں ڈال کر ، گناہ کو بچایا ، جو مجھے سکھایا کہ خدا کا نام سے ایک شخص کرا ہے. || 2 | | اے ‘ میرے حقیقی گرو ، میں آپ کے فضائل کی وضاحت نہیں کر سکتا کیونکہ جیسے ہی میں لفظ گرو بیان کرتا ہوں ، میرا دماغ ایکسٹیسی میں جاتا ہےسچے گرو نے مجھ سے بچایا اور آزاد کیا ہے ، اور جو میرے جیسے گنہگار کو بچا سکتے ہیں ؟اے خُدا ، تُو میرا گرو باپ ، میرا گرو ماں ، میرا گرو ، میرا دوست اور میرا ساتھی ہے ۔ | | 3 | | اے ‘ میرا سچا گرو ، آپ خود جانتے ہیں کہ میری صورت حال کیا ہےمیں بیکسانہ گھومنے کے لئے استعمال کیا اور کوئی بھی میرے لئے دیکھ بھال. مجھے سچا گرو کی کمپنی میں لا کر ، میری طرح ایک کیڑا بلند کیا گیا ہے. اے ‘ نانک, عظیم گرو ہے, ملاقات اور اس کی تعلیمات پر عمل, تمام مصیبتوں اور مشکلات ختم ہو گئی ہےمیری زندگی دولت اور عورت کی محبت میں مصروف رہے ہے ۔ اس دنیاوی پیار سے منسلک میرے لئے میٹھا لگتا ہےمیرا دماغ دنیاوی خوشیوں سے منسلک ہے اور اچھا گھروں ، محلات اور گھوڑوں کو دیکھ کر خوش ہو جاتا ہے”اے میرے قادر خُدا ، یاد رکھنے کے بارے میں سوچ بھی میرے ذہن میں داخل نہیں ہوتا ، مجھے حیرت ہے کہ میں اِن دنیاوی ملحقات سے کیسے آزاد رہ سکتا ہوں ؟ | | 1 | | اے میرے خُدا ، یہ میرے گناہ کے اعمال ہیں ۔اے خُدا ، تُو فضائل اور مہربانی کا خزانہ ہے ۔ مجھ پر رحم کر اور میرے گناہوں کو معافی دے ۔میرے پاس کوئی خوبصورتی نہیں ، کوئی سماجی حیثیت نہیں ہے اور یہاں تک کہ میرا رویہ راستباز نہیں ہےفضیلت سے مبرا ، میں اپنے آپ سے کیا بات کروں گا ، جنہوں نے آپ کے نام پر کبھی مراقبہ نہیں کیا ہے ؟میرے جیسے ایک گنہگار کو بچا لیا گیا ہے ، یہ سچ گرو اور مقدس جماعت کی ادار نعمت کی وجہ سے ہے. | | 2 | | خدا نے مجھے روح ، جسم ، منہ ، ناک اور پانی کے استعمال کے لئے دیا. اس نے مجھے کھانے ، کپڑے پہننے اور دیگر خوشیوں سے لطف اندوز کرنے کے لئے کھانا دیا لیکن میں نے اسے بھی یاد نہیں کیا جس نے مجھے یہ سب کچھ دیا ، اور ایک جانور کی طرح مجھے لگتا ہے کہ میں نے ان چیزوں کو اپنے اوپر حاصل کیا. || 3 | |اے خُدا ، جو کچھ بھی ہوتا ہے وہ تیری مرضی کے مطابق ہے اور آپ دلوں سے واقف ہیں ۔اے خُدا ، چونکہ یہ دنیا آپ کا کھیل ہے ، ہم بے بس مخلوق کیا کر سکتے ہیں ؟نانک آپ کے عقیدت مندوں کا سب سے زیادہ شائستہ بندہ ہے, کے طور پر اگر انہوں نے اپنے آپ کو مقدس جماعت کو فروخت کیا ہے.

گئُڑی بیَراگݨِ محلا 4॥
جِءُ جننی سُتُ جݨِ پالتی راکھےَ ندرِ مجھارِ ॥
انّترِ باہرِ مُکھِ دے گِراسُ کھِنُ کھِنُ پۄچارِ ॥
تِءُ ستِگُرُ گُرسِکھ راکھتا ہرِ پ٘ریِتِ پِیارِ ॥1॥
میرے رام ہم بارِک ہرِ پ٘ربھ کے ہےَ اِیاݨے ॥
دھنّنُ دھنّنُ گُرۄُ گُرُ ستِگُرُ پادھا جِنِ ہرِ اُپدیسُ دے کیِۓ سِیاݨے ॥1॥ رہاءُ ॥
جیَسی گگنِ پھِرنّتی اۄُڈتی کپرے باگے والی ॥
اۄہ راکھےَ چیِتُ پیِچھےَ بِچِ بچرے نِت ہِردےَ سارِ سمالی ॥
تِءُ ستِگُر سِکھ پ٘ریِتِ ہرِ ہرِ کی گُرُ سِکھ رکھےَ جیء نالی ॥2॥
جیَسے کاتی تیِس بتیِس ہےَ وِچِ راکھےَ رسنا ماس رتُ کیری ॥
کۄئی جاݨہُ ماس کاتی کےَ کِچھُ ہاتھِ ہےَ سبھ وسگتِ ہےَ ہرِ کیری ॥
تِءُ سنّت جنا کی نر نِنّدا کرہِ ہرِ راکھےَ پیَج جن کیری ॥3॥
بھائی مت کۄئی جاݨہُ کِسی کےَ کِچھُ ہاتھِ ہےَ سبھ کرے کرائِیا ॥
جرا مرا تاپُ سِرتِ ساپُ سبھُ ہرِ کےَ وسِ ہےَ کۄئی لاگِ ن سکےَ بِنُ ہرِ کا لائِیا ॥
ایَسا ہرِ نامُ منِ چِتِ نِتِ دھِیاوہُ جن نانک جۄ انّتی ائُسرِ لۓ چھڈائِیا ॥4॥7॥ 13 ॥ 51 ॥
گئُڑی بیَراگݨِ محلا 4॥
جِسُ مِلِۓَ منِ ہۄءِ اننّدُ سۄ ستِگُرُ کہیِۓَ ॥
من کی دُبِدھا بِنسِ جاءِ ہرِ پرم پدُ لہیِۓَ ॥1॥
میرا ستِگُرُ پِیارا کِتُ بِدھِ مِلےَ ۔ ॥
ہءُ کھِنُ کھِنُ کری نمسکارُ میرا گُرُ پۄُرا کِءُ مِلےَ ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
کرِ کِرپا ہرِ میلِیا میرا ستِگُرُ پۄُرا ॥
اِچھ پُنّنی جن کیریِیا لے ستِگُر دھۄُرا ॥2॥
ہرِ بھگتِ د٘رِڑاوےَ ہرِ بھگتِ سُݨےَ تِسُ ستِگُر مِلیِۓَ ॥
تۄٹا مۄُلِ ن آوئی ہرِ لابھُ نِتِ د٘رِڑیِۓَ ॥3॥
جِس کءُ رِدےَ وِگاسُ ہےَ بھاءُ دۄُجا ناہی ॥
نانک تِسُ گُر مِلِ اُدھرےَ ہرِ گُݨ گاواہی ॥4॥8॥ 14 ॥ 52 ॥
محلا 4 گئُڑی پۄُربی ॥
ہرِ دئِیالِ دئِیا پ٘ربھِ کیِنی میرےَ منِ تنِ مُکھِ ہرِ بۄلی ॥
گُرمُکھِ رنّگُ بھئِیا اتِ گۄُڑا ہرِ رنّگِ بھیِنی میری چۄلی ॥1॥
اپُنے ہرِ پ٘ربھ کی ہءُ گۄلی ॥
جب ہم ہرِ سیتی منُ مانِیا کرِ دیِنۄ جگتُ سبھُ گۄل امۄلی ॥1॥ رہاءُ ॥
کرہُ بِبیکُ سنّت جن بھائی کھۄجِ ہِردےَ دیکھِ ڈھنّڈھۄلی ॥
ہرِ ہرِ رۄُپُ سبھ جۄتِ سبائی ہرِ نِکٹِ وسےَ ہرِ کۄلی ॥1॥
بس ماں کے طور پر ، ایک بیٹے کو جنم دیا ہے ، اسے لاتا ہے اور اس پر ایک آنکھ رکھتا ہے. گھر سے باہر اور باہر کام کرتے ہوئے, وہ باقاعدگی سے ان کو فیڈ, اور ہر پل بندر. اسی طرح سچا گرو ان کے شامل کی دیکھ بھال کرتا ہے جو ان میں خدا کے لئے محبت اور پیار ہے ، ہم آپ کے معصوم بچوں ہیں. مُبارک ہے کہ ہمارا اُستاد ، سچا گرو ، جس نے ہمیں دانائی کے علم کے ساتھ ہمیں دینے ۔ بس کے طور پر, آسمان ایک سفید پنکھوں راجہنس میں پرواز کرتے ہوئے, اس کے خیالات میں چھوڑ دیا اور اس کے دل میں ان کو یاد رکھتا ہے جو ان کے نوجوان ہے. اسی طرح سچا گرو اپنے سکھوں (شاگردوں) کو خدا کی محبت سے امبواس ہے اور ان کے دل سے ان کی دیکھ بھال کرتا رہتا ہے ۔ جیسا کہ زبان ، گوشت اور خون سے بنا ، 32 دانت کے قینچی کے اندر محفوظ ہے. اس سے پتہ چلتا ہے کہ اگر طاقت زبان میں مضمر ہے تو خود کو دانت کے قینچی سے بچانے کے لۓ. یہ سب خدا کے کنٹرول کے تحت ہے. صرف اسی طرح ، جبکہ لوگ سنتوں بہتان ، لیکن خدا اپنے عقیدت کی عزت کو محفوظ رکھتا ہے. اے بھائیو ، کبھی نہیں لگتا کہ کسی کو بھی کسی کے کنٹرول میں ہے. یہ خدا ہے جو سب کچھ کرتا ہے ، اور سب کچھ کیا جائے کا سبب بنتا ہے. بڑھاپے ، موت ، درد ، بخار ، اور مذمت خدا کے ہاتھوں میں ہیں ، اور خدا کی مرضی کے بغیر ، کوئی نقصان کسی کو نہیں آ سکتا. اے ‘ نانک ، آپ کے ہوش دماغ کے ساتھ خدا کے نام پر ہمیشہ مراقبہ ، جو آخر میں آپ کو فراہم کرے گا. اس نے جس سے ملاقات کی وہ سچی گرو کہلاتا ہے ۔ ڈبل نظری روانہ ، اور خدا کے ساتھ یونین کے سپریم روحانی حیثیت حاصل کی ہے. میں اپنے پیارے سچے گرو سے کیسے مل سکتا ہوں ؟ ہر لمحے ، میں نے اپنے سچے گرو سے کیسے مل سکتا ہے جو مجھے بتا سکتا ہے جو ایک پر عاجزی کی بو. رحم ، جس کو خدا نے میرے کامل سچا گرو کے ساتھ متحد کیا ہے ، ان کی تمام خواہشات کو گرو کے پاؤں کی دھول حاصل کرنے کی طرف سے پورا کیا گیا ہے (گرو کی تعلیمات کے بعد عاجزی) ، ہمیں اس طرح کے ایک سچے گرو کو پورا کرنا چاہئے جو دل میں خدا کی امپلنٹس کی عبادت کرتا ہے ، اور اس سے ملنے کے لئے ایک ییارن ہے جو خدا کی تعریف کی جس سے ایک ہمیشہ خدا کے نام کی دولت کماتا ہے اور کسی بھی نقصان کا شکار نہیں ہوتا. اس طرح کا ایک گرو جس کا دل الہی خوشی سے خوش ہوتا ہے اور جو کسی دنیاوی دلچسپی کے ساتھ محبت میں نہیں ہے. اے ‘ نانک ، اس طرح کے ایک گرو سے ملاقات ہمیشہ خدا کی تعریف کرتا ہے اور سے محفوظ کیا جاتا ہے. مہربان خُدا نے اپنی رحمت کا اظہار کیا ہے ، اور اب میرے ذہن اور جسم میں خُدا کی حمد کے کلام کو ظاہر کرتا ہے ۔ گرو کے فضل سے میں خدا کے لئے اس طرح کی گہری محبت کے ساتھ حواریوں گیا ہوں ، جیسا کہ میری لباس (میرا پورا جسم) اس محبت کے رنگ میں مکمل طور پر بھیگ گیا ہے. میں اپنے خدا کے نوکرانی کا بندہ ہوں ۔ جب تک میرے ذہن نے خدا پر مکمل یقین کیا ہے ، میں محسوس کرتا ہوں کہ وہ پوری دنیا کو ایک قیمت کے بغیر اپنی خدمت میں ڈال دیا ہے. اے عزیز ساینٹل برادران ، اگر آپ گہری عکاسی کرتے ہیں اور اپنے دلوں کو تلاش کرتے ہیں ، تو آپ کو مل جائے گا کہ خوبصورتی اور خدا کی روشنی سب میں موجود ہے. تمام جگہوں پر ، خدا قریبی رہتا ہے ، سب کے قریب.
ہرِ ہرِ نِکٹِ وسےَ سبھ جگ کےَ اپرنّپر پُرکھُ اتۄلی ॥
ہرِ ہرِ پ٘رگٹُ کیِئۄ گُرِ پۄُرےَ سِرُ ویچِئۄ گُر پہِ مۄلی ॥3॥
ہرِ جی انّترِ باہرِ تُم سرݨاگتِ تُم وڈ پُرکھ وڈۄلی ॥
جنُ نانکُ اندِنُ ہرِ گُݨ گاوےَ مِلِ ستِگُر گُر ویچۄلی ॥4॥1॥ 15 ॥ 53 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 4॥
جگجیِون اپرنّپر سُیامی جگدیِسُر پُرکھ بِدھاتے ۔ ॥
جِتُ مارگِ تُم پ٘ریرہُ سُیامی تِتُ مارگِ ہم جاتے ॥1॥
رام میرا منُ ہرِ سیتی راتے ॥
ستسنّگتِ مِلِ رام رسُ پائِیا ہرِ رامےَ نامِ سماتے ॥1॥ رہاءُ ॥
ہرِ ہرِ نامُ ہرِ ہرِ جگِ اوکھدھُ ہرِ ہرِ نامُ ہرِ ساتے ॥
تِن کے پاپ دۄکھ سبھِ بِنسے جۄ گُرمتِ رام رسُ کھاتے ॥2॥
جِن کءُ لِکھتُ لِکھے دھُرِ مستکِ تے گُر سنّتۄکھ سرِ ناتے ॥
دُرمتِ میَلُ گئی سبھ تِن کی جۄ رام نام رنّگِ راتے ॥3॥
رام تُم آپے آپِ آپِ پ٘ربھُ ٹھاکُر تُم جیوڈ اورُ ن داتے ॥
جنُ نانکُ نامُ لۓ تاں جیِوےَ ہرِ جپیِۓَ ہرِ کِرپا تے ॥4॥2॥ 16 ॥ 54 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 4॥
کرہُ ک٘رِپا جگجیِون داتے میرا منُ ہرِ سیتی راچے ॥
ستِگُرِ بچنُ دیِئۄ اتِ نِرملُ جپِ ہرِ ہرِ ہرِ منُ ماچے ॥1॥
رام میرا منُ تنُ بیدھِ لیِئۄ ہرِ ساچے ॥
جِہ کال کےَ مُکھِ جگتُ سبھُ گ٘رسِیا گُر ستِگُر کےَ بچنِ ہرِ ہم باچے ॥1॥ رہاءُ ॥
جِن کءُ پ٘ریِتِ ناہی ہرِ سیتی تے ساکت مۄُڑ نر کاچے ॥
تِن کءُ جنمُ مرݨُ اتِ بھاری وِچِ وِسٹا مرِ مرِ پاچے ॥2॥
تُم دئِیال سرݨِ پ٘رتِپالک مۄ کءُ دیِجےَ دانُ ہرِ ہم جاچے ॥
ہرِ کے داس داس ہم کیِجےَ منُ نِرتِ کرے کرِ ناچے ॥3॥
آپے ساہ وڈے پ٘ربھ سُیامی ہم وݨجارے ہہِ تا چے ॥
میرا منُ تنُ جیءُ راسِ سبھ تیری جن نانک کے ساہ پ٘ربھ ساچے ۔ ॥4॥3॥ 17 ॥ 55 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 4॥
تُم دئِیال سرب دُکھ بھنّجن اِک بِنءُ سُنہُ دے کانے ॥
جِس تے تُم ہرِ جانے سُیامی سۄ ستِگُرُ میلِ میرا پ٘رانے ॥1॥
رام ہم ستِگُر پارب٘رہم کرِ مانے ॥
ہم مۄُڑ مُگدھ اسُدھ متِ ہۄتے گُر ستِگُر کےَ بچنِ ہرِ ہم جانے ॥1॥ رہاءُ ॥
جِتنے رس ان رس ہم دیکھے سبھ تِتنے پھیِک پھیِکانے ॥

خدا جو تمام وسعت ہے ، بے انتہا اور جن کے فضائل کا اندازہ نہیں لگایا جا سکتا ، پوری دنیا کے قریب رہتا ہے ۔ کامل گرو نے میرے لئے خدا کو نازل کیا ہے ، لہذا میں نے مکمل طور پر گرو کو ہتھیار ڈال دیا ہے ، جیسا کہ میں نے اپنے سر کو ایک قیمت کے لئے گرو میں فروخت کیا ہے. اے خُدا ، تُو تمام مخلوقات میں اور باہر دونوں پرمیاٹانگ ہیں ، میں تیری پناہ گاہ میں آیا ہوں ، تُو زیادہ بلند ترین ہے ۔ سچے گرو ، الہی ثالث سے ملاقات ، نانک ہمیشہ خدا کی تعریف گاتی ہیں. اے ‘ خدا ، دنیا کی زندگی ، اے ‘ لامحدود خدا اور ماسٹر ، اے ‘ کائنات کے مالک ، تمام وسعت خالق ، جس طرح سے آپ ہمیں ہدایت کرتے ہیں ، اسی طرح ہم پیروی کرتے ہیں. اے خُدا ، میرا من تیری محبت کے ساتھ حواریوں ہے ۔ مقدس جماعت میں شامل ہونے سے ، میں نے خدا کی محبت کی شاندار جوہر حاصل کی ہے ، اور میں اس کے نام میں جذب ہوں. خدا کا نام تمام بیماریوں اور دنیا میں امن کے فراہم کرنے کا علاج ہے. گرو کی تعلیمات کے بعد ، وہ لوگ جو خدا کے نام کے آب میں حصہ لیتے ہیں ، ان کے تمام گناہوں اور دکھوں کو ختم کر دیا جاتا ہے ۔ وہ لوگ جنہوں نے پہلے سے مقرر کردہ قسمت ہے ، وفاداری گرو کی رہنمائی کی پیروی کرتے ہیں اور ایک مطمئن زندگی بسر کرتے ہیں ، جیسے وہ قناعت کے گرو کے پول میں غسل کرتے ہیں. بدی کی گندگی نظری کو مکمل طور پر دھویا جاتا ہے ، اُن سے جو خُدا کے نام کی محبت کے ساتھ حواریوں ہیں ۔ اے خدا ، آپ خود اپنے آقا ہیں ۔ اے خدا تمہارے مقابلے میں کوئی بڑا فیاض نہیں ہے ۔ نانک روحانی طور پر زندہ رہتا ہے صرف اس صورت میں جب وہ نام پر یاد ، خدا کے نام پر مراقبہ صرف اس کے فضل کے ذریعے کیا جا سکتا ہے. اے دنیا کی زندگی ، اے عظیم ، براہِ کرم مجھ پر رحم کر ، تاکہ میرا من تیری باخبر رہے ۔ سچے گرو نے سب سے زیادہ نرمل کی تعلیمات عطا کئے ہیں ، جو خدا کے نام پر مراقبہ کرتے ہوئے ، میرا من ایکسٹیسی میں جاتا ہے ۔ اے ‘ خُدا ، فیصلے رحمت ، تُو نے مجھے اپنے نام سے متحد کیا ہے جیسا کہ میرا بدن اور دماغ تیرے پیار کے ساتھ چھید ہے ۔ ساری دنیا خوف کی موت کی گرفت میں ہے ، اس سے مجھے حقیقی گرو کی تعلیمات کے بعد سے بچایا گیا ہے ۔ وہ بے وقوف ، بے اعتقاد کیناکس جو خدا کے لئے کوئی محبت نہیں رکھتے روحانی طور پر نادان ہیں. وہ پیدائش اور موت کے ادوار میں انتہائی تکلیف برداشت. وہ روحانی طور پر پھر سے زیادہ مر جاتے ہیں ، اور vices کی گندگی میں پھینک دیتے ہیں. اے خُدا ، تُو اُن کے مہربان محافظ ہیں جو تیری پناہ کے متلاشی ہیں ۔ میں تجھے بھیک دیتا ہوں ، براہِ کرم مُجھے اپنے نام کا تحفہ عطا فرما ۔ مجھے اپنا سب سے شائستہ بندہ بنا تاکہ میرا من تیری محبت کی خوشی میں رقص کرے ۔ خدا خود عظیم بینکر اور ماسٹر ہے. میں اس کے چھوٹے تاجر ہوں نانک کے ابدی خدا. میرے دماغ ، جسم اور روح آپ کی طرف سے مبارک ہیں. اے خُدا ، تُو تمام تر درد کا مہربان مخرب ہے ، براہِ کرم میری ایک دُعا کو میری بات سُن ۔ براہِ کرم مُجھے حقیقی گرو ، میری زندگی کے ساتھ متحد کر ۔ جن کی رحمت سے آپ کو احساس ہوتا ہے ۔ || 1 | اے خُدا ، میں حقیقی گرو کو اوتار خدا کے طور پر تسلیم کرتا ہوں ۔ میں آلودہ عقل کے ساتھ بے وقوف اور جاہل شخص تھا ، لیکن کے ذریعے میں نے خدا کو محسوس کیا ہے ۔ || 1 | | توقف | تمام دنیاوی خوشیوں اور انجویمانتس جو میں نے دیکھا ہے-میں نے ان سب کو آمدورفتوں اور سیٹھا کے لئے پایا ہے.

ہرِ کا نامُ انّم٘رِت رسُ چاکھِیا
مِلِ ستِگُر میِٹھ رس گانے ॥2॥
جِن کءُ گُرُ ستِگُرُ نہی بھیٹِیا
تے ساکت مۄُڑ دِوانے ॥
تِن کے کرمہیِن دھُرِ پاۓ
دیکھِ دیِپکُ مۄہِ پچانے ॥3॥
جِن کءُ تُم دئِیا کرِ میلہُ
تے ہرِ ہرِ سیو لگانے ॥
جن نانک ہرِ ہرِ ہرِ جپِ پ٘رگٹے
متِ گُرمتِ نامِ سمانے ॥4॥4॥ 18 ॥ 56 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 4॥
میرے من سۄ پ٘ربھُ سدا نالِ ہےَ سُیامی
کہُ کِتھےَ ہرِ پہُ نسیِۓَ ۔ ॥
ہرِ آپے بخشِ لۓ پ٘ربھُ ساچا
ہرِ آپِ چھڈاۓ چھُٹیِۓَ ॥1॥
میرے من جپِ ہرِ ہرِ
ہرِ منِ جپیِۓَ ॥
ستِگُر کی سرݨائی بھجِ پءُ میرے منا
گُر ستِگُر پیِچھےَ چھُٹیِۓَ ॥1॥ رہاءُ ॥
میرے من سیوہُ سۄ پ٘ربھ س٘رب سُکھداتا
جِتُ سیوِۓَ نِج گھرِ وسیِۓَ ॥
گُرمُکھِ جاءِ لہہُ گھرُ اپنا
گھسِ چنّدنُ ہرِ جسُ گھسیِۓَ ॥2॥
میرے من ہرِ ہرِ ہرِ ہرِ ہرِ جسُ اۄُتمُ
لےَ لاہا ہرِ منِ ہسیِۓَ ॥
ہرِ ہرِ آپِ دئِیا کرِ دیوےَ
تا انّم٘رِتُ ہرِ رسُ چکھیِۓَ ॥3॥
میرے من نام بِنا جۄ دۄُجےَ لاگے
تے ساکت نر جمِ گھُٹیِۓَ ॥
تے ساکت چۄر جِنا نامُ وِسارِیا
من تِن کےَ نِکٹِ ن بھِٹیِۓَ ॥4॥
میرے من سیوہُ الکھ نِرنّجن نرہرِ
جِتُ سیوِۓَ لیکھا چھُٹیِۓَ ॥
جن نانک ہرِ پ٘ربھِ پۄُرے کیِۓ
کھِنُ ماشا تۄلُ ن گھٹیِۓَ ॥5॥5॥ 19 ॥ 57 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 4॥
ہمرے پ٘ران وسگتِ پ٘ربھ تُمرےَ
میرا جیءُ پِنّڈُ سبھ تیری ॥
دئِیا کرہُ ہرِ درسُ دِکھاوہُ
میرےَ منِ تنِ لۄچ گھݨیری ॥1॥
رام میرےَ منِ تنِ لۄچ
مِلݨ ہرِ کیری ॥
گُر ک٘رِپالِ ک٘رِپا کِنّچت گُرِ کیِنی
ہرِ مِلِیا آءِ پ٘ربھُ میری ॥1॥ رہاءُ ॥
جۄ ہمرے من چِتِ ہےَ سُیامی
سا بِدھِ تُم ہرِ جانہُ میری ॥
اندِنُ نامُ جپی سُکھُ پائی
نِت جیِوا آس ہرِ تیری ॥2॥
گُرِ ستِگُرِ داتےَ پنّتھُ بتائِیا
ہرِ مِلِیا آءِ پ٘ربھُ میری ॥
اندِنُ اندُ بھئِیا وڈبھاگی
سبھ آس پُجی جن کیری ॥3॥
جگنّناتھ جگدیِسُر کرتے
سبھ وسگتِ ہےَ ہرِ کیری ॥
جن نانک سرݨاگتِ آۓ
ہرِ راکھہُ پیَج جن کیری ॥4॥6॥ 20 ॥ 58 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 4॥
اِہُ منۄُیا کھِنُ ن ٹِکےَ بہُ رنّگی
دہ دہ دِسِ چلِ چلِ ہاڈھے ॥
سچے گرو سے ملاقات میں میں نے خدا کے نام کی مہکنا امرت چکھا ہے. یہ میٹھا ہے ، جیسے کہ گنے کا رس ۔ جو لوگ سچے گرو سے ملاقات نہیں رکھتے وہ بے وقوف اور پاگل ہیں ، وہ بے اعتقاد کیناکس ہیں ۔ یہ پرہیزگاروں کے اعمال سے مبرا ہیں ۔ انہوں نے ایک شعلہ میں ایک کیڑے برنز کی طرح مایا کی جذباتی وابستگی کی آگ میں جلا. | | 3 | | اے خدا ، جس پر رحم کرے تم گرو کے ساتھ متحد ہو ، وہ پیار آپ کے عقیدت کی عبادت میں مصروف رہتے ہیں ۔ اے ‘ نانک, گرو کی تعلیمات کی پیروی کر کے, وہ نام پر باخبر رہے ہیں اور وہ ہمیشہ خدا کے نام پر مراقبہ کی طرف سے معروف ہو. اے میرے ذہن میں ، خدا آپ کے ساتھ ہمیشہ ہے ، مجھے بتاو کہ آپ اس کی موجودگی سے کیسے بچ سکتے ہیں ؟ ابدی خُدا خود معافی دیتا ہے ۔ ہمیں کی گرفت سے آزاد کر دیا جاتا ہے جب وہ خود کو امانکاپاٹیس ہے ۔ اے میرے ذہن میں ہمیشہ خُدا کے نام پر مراقبہ کرتے ہیں ۔ “میرا من سچا گرو کی پناہ طلب کرنا چاہتا ہے ۔ مایا کی بانڈز سے رہائی سچی گرو کی تعلیمات کی پیروی کرکے حاصل کی جاتی ہے ۔ | | 1 | | توقف | اے ‘ میرے ذہن, محبت خدا پر غور, امن کی عطا. محبت اور عقیدت کے ساتھ اسے یاد رکھنا ہم دل میں اس کی موجودگی محسوس کر سکتے ہیں. گرو کے ذریعے ، جاؤ اور اپنے دل کو دوبارہ کریں (خدا کا ٹھکانا). جیسا کہ چندن پتھر پر بار بار رگڑ کی طرف سے خوشبودار ہو جاتا ہے ، اسی طرح ہماری روحانی زندگی خدا کی تعریف کو دوبارہ اور پھر سے بلاسسفولل ہو جاتا ہے. اے میرے ذہن ، خدا کی تعریف سب سے زیادہ منفرد دولت ہے. خدا کے نام کے منافع کمانے کی طرف سے ایک نعمتوں سے لطف اندوز کر سکتے ہیں. جب خُدا اپنی رحمت میں ، اُس کے نام کا تحفہ رکھے ، تو ہم نام کے مہکنا جوہر کا لطف لیتے ہیں ۔ || 3 | اے ‘ میرے ذہن, نام اور دوگانگی سے منسلک کے بغیر, بے اعتقاد کیناکس اس طرح کے بڑے درد کا شکار ہے, کے طور پر اگر وہ موت کے شیطان کی طرف سے سٹرانگولاٹید ہیں. اس طرح بے اعتقاد کیناکس ، جو نام بھول گئے ہیں ، چور کی طرح ہیں. اے میرے دماغ کو بھی ان کے قریب نہیں جانا ۔ اے ‘ میرے ذہن, محبت سمجھ اور نرمل خدا پر غور, اس کو یاد کر کے, ہمارے ماضی کے اعمال کے تمام اکاؤنٹس صاف کر رہے ہیں. اے نانک ، جن کو خدا نے راست زندگی کے ساتھ برکت دی ہے ، اس سے بھی زیادہ فضائل میں کمی نہیں ہوتی ۔ اے خُدا ، میری زندگی کا دم تیری قوت میں ہے ، میری رُوح اور بدن مکمل طور پر تیرا ہیں ۔ میرے جسم اور دماغ میں آپ کے لئے ایک شدید ترس ہے. براہِ کرم رحم کر ، اور مجھے اپنی حضوری محسوس کر ۔ اے خُدا ، میرے دماغ اور بدن کے اندر ایسی بڑی چاہت ہے جو کہ تیرے ساتھ متحد ہو جائے ۔ جب رحم گرو نے صرف ایک چھوٹی سی رحمت ظاہر کی ، میں نے خدا کی موجودگی میرے اندر محسوس کی ۔ اے خُدا ، جو کچھ بھی میرے شعوری ذہن میں ہے ، میری حالت تیرے لیے جانا جاتا ہے ، اے خُدا ، میں اپنی امیدوں کو تیرے اندر رکھتا ہوں ، میری خواہش یہ ہے کہ میں ہمیشہ تیرے نام پر مراقبہ اور سلامتی میں زندگی بسر کر سکوں ۔ حقیقی گرو ، نام کے تحفے کے عطا ، مجھے خُدا کے طور پر احساس کرنے کا راستہ دکھایا گیا تھا ، میں خُدا کے ساتھ متحد تھا ۔ بہت اچھی خوش قسمتی سے میں ہمیشہ کے لئے نعمتوں میں ہوں ۔ اور میری ساری امیدیں پوری ہوچکی ہیں ۔ اے خدا ، دنیا کے خالق ، یہ سب آپ کے کنٹرول کے تحت ہے. اے نانک ، میں اپنے آپ کو پناہ کی تلاش میں ہوں ، براہِ کرم میری عزت کو محفوظ کر ۔ یہ من تمام دنیاوی ملوث میں بھی موجود نہیں رہتا اور ہر طرف پینٹنگوں کے ارد گرد ایک فوری اور ے ۔

گُرُ پۄُرا پائِیا وڈبھاگی
ہرِ منّت٘رُ دیِیا منُ ٹھاڈھے ॥1॥
رام ہم ستِگُر لالے کانْڈھے ॥1॥ رہاءُ ॥
ہمرےَ مستکِ داگُ دگانا
ہم قرض گُرۄُ بہُ ساڈھے ॥
پرئُپکارُ پُنّنُ بہُ کیِیا
بھءُ دُترُ تارِ پراڈھے ॥2॥
جِن کءُ پ٘ریِتِ رِدےَ ہرِ ناہی
تِن کۄُرے گاڈھن گاڈھے ॥
جِءُ پاݨی کاگدُ بِنسِ جات ہےَ
تِءُ منمُکھ گربھِ گلاڈھے ॥3॥
ہم جانِیا کچھۄُ ن جانہ آگےَ
جِءُ ہرِ راکھےَ تِءُ ٹھاڈھے ॥
ہم بھۄُل چۄُک گُر کِرپا دھارہُ
جن نانک کُترے کاڈھے ॥4॥7॥ 21 ॥ 59 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 4॥
کامِ کرۄدھِ نگرُ بہُ بھرِیا
مِلِ سادھۄُ کھنّڈل کھنّڈا ہے ॥
پۄُربِ لِکھت لِکھے گُرُ پائِیا
منِ ہرِ لِو منّڈل منّڈا ہے ॥1॥
کرِ سادھۄُ انّجُلی
پُنّنُ وڈا ہے ॥
کرِ ڈنّڈئُت
پُنُ وڈا ہے ॥1॥ رہاءُ ॥
ساکت ہرِ رس سادُ ن جانِیا
تِن انّترِ ہئُمےَ کنّڈا ہے ॥
جِءُ جِءُ چلہِ چُبھےَ دُکھُ پاوہِ
جمکالُ سہہِ سِرِ ڈنّڈا ہے ॥2॥
ہرِ جن ہرِ ہرِ نامِ سماݨے
دُکھُ جنم مرݨ بھو کھنّڈا ہے ॥
ابِناسی پُرکھُ پائِیا پرمیسرُ
بہُ سۄبھ کھنّڈ ب٘رہمنّڈا ہے ॥3॥
ہم غریِب مسکیِن پ٘ربھ تیرے
ہرِ راکھُ راکھُ وڈ وڈا ہے ॥
جن نانک نامُ ادھارُ ٹیک ہےَ
ہرِ نامے ہی سُکھُ منّڈا ہے ॥4॥8॥ 22 ॥ 60 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 4॥
اِسُ گڑ مہِ ہرِ رام راءِ ہےَ
کِچھُ سادُ ن پاوےَ دھیِٹھا ॥
ہرِ دیِن دئِیالِ انُگ٘رہُ کیِیا
ہرِ گُر سبدی چکھِ ڈیِٹھا ॥1॥
رام ہرِ کیِرتنُ گُر لِو میِٹھا ॥1॥ رہاءُ ॥
ہرِ اگمُ اگۄچرُ پارب٘رہمُ ہےَ
مِلِ ستِگُر لاگِ بسیِٹھا ॥
جِن گُر بچن سُکھانےَ ہیِئرےَ
تِن آگےَ آݨِ پریِٹھا ॥2॥
منمُکھ ہیِئرا اتِ کٹھۄرُ ہےَ
تِن انّترِ کار کریِٹھا ॥
بِسیِئر کءُ بہُ دۄُدھُ پیِیائیِۓَ
بِکھُ نِکسےَ پھۄلِ پھُلیِٹھا ॥3॥
ہرِ پ٘ربھ آنِ مِلاوہُ گُرُ سادھۄُ
گھسِ گرُڑُ سبدُ مُکھِ لیِٹھا ॥
جن نانک گُر کے لالے گۄلے
لگِ سنّگتِ کرۄُیا میِٹھا ॥4॥9॥ 23 ॥ 61 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 4॥
ہرِ ہرِ ارتھِ سریِرُ ہم بیچِیا
پۄُرے گُر کےَ آگے ॥
ستِگُر داتےَ نامُ دِڑائِیا
مُکھِ مستکِ بھاگ سبھاگے ॥1॥
رام گُرمتِ ہرِ لِو لاگے ॥1॥ رہاءُ ॥
خوش قسمتی سے میں نے کامل گرو سے ملاقات کی ہے. اُس نے مجھے خُدا کے نام پر مراقبہ کا منتر دیا ہے ، جس سے میرا من شانت ہو گیا ہے ۔ اے خُدا ، میں حقیقی گرو کا بندہ کہلائے گا ۔ میں گرو کے لئے اس طرح ایک بہت بڑا قرض قرض, اس وجہ سے میں اس کے خادم کے طور پر برانڈڈ ہوں. گرو میرے لئے بہت فیاض اور مہربان رہا ہے ، اس نے مجھے کے غدار اور خوفناک دنیا سمندر بھر میں فررید ہے. ان کے دلوں کے اندر خدا کے لئے محبت نہیں ہے وہ لوگ جو, غلط بانڈز میں خود بندھے ہوئے ہیں.
جیسے ہی کاغذ ٹوٹ جاتا ہے اور پانی میں تحلیل کر ہے ، اسی طرح ان کی خود کو اپنی طرف سے لوگوں کی پیدائش اور موت کے ادوار میں روحانی طور پر ضائع ہو جاتا ہے ۔ہم پہلے کچھ نہیں جانتے تھے ، اور نہ ہی ہم اب جانتے ہیں. تو ہم جو بھی ریاست خدا ہمیں رکھتا ہے میں رہنے. نانک کہتے ہیں ، اے گرو ، ہم آپ کے پالتو جانوروں کی جیسے ہیں ، مہربانی فرما کر ہماری غلطیوں کو نظرانداز کریں ۔ انسانی جسم ہوس اور غصے سے بھرا ہوا ہے ۔ ان کو گرو کی تعلیمات کے بعد تباہ کر دیا جا سکتا ہے ۔ وہ جو پہلے سے مقرر شدہ قسمت کے طور پر گرو کے ساتھ ملاقات, اس کے دماغ خدا کی محبت کو باخبر ہو جاتا ہے. ایک عظیم فضیلت کے ساتھ گرو کے پاس جھکنا ، یہ ایک بہت اچھا کام ہے. گرو کے سامنے سجدہ کرو ۔ یہ تو سب سے زیادہ نیک عمل ہے ۔ بے اعتقاد کیناکس ، خدا کے نام کی شاندار جوہر کا ذائقہ نہیں جانتے ، کیونکہ انانیت کو ایک کانٹا کی طرح ان کے اندر گہرائی میں شامل کیا جاتا ہے. جیسا کہ وہ اپنی زندگی کی قیادت کرتے ہیں ، انا کی یہ کانٹا ان کو زیادہ سے زیادہ تکلیف دیتا ہے ، اور وہ ان کے سر پر روحانی موت کی اذیت پر برداشت کرتے ہیں. خدا کے فروتن اس کے نام پر جذب رہتے ہیں ، اور پیدائش اور موت کا درد خاتمہ ہے. وہ ابدی سپریم خدا کا احساس, اور کے تمام علاقوں میں عظیم اعزاز حاصل. اے عظیم خدا کی سب سے بڑی ، ہم آپ کے شائستہ خادم ہیں ، براہ مہربانی ہمیں بچا. اے ‘ نانک ، جس کی زندگی میں صرف ایک ہی رزق اور معاون نام ہے ، نام کے ذریعے روحانی نعمت حاصل کرتا ہےدنیاوی میں جذب ہونے کی وجہ سے ، ضد فانی جسم کے اندر سپریم خدا کی موجودگی کی نعمتوں سے لطف اندوز نہیں ہوتا ۔ جس پر حلیم کے مہربان خُدا نے رحم کیا ہے ، گرو کے کلام کے وسیلہ سے اُس نے خُدا کی محبت کا مزہ چکھا ہے اے خدا ، گرو کی محبت کو باخبر کرتے وقت اپنی تعریف کو گانا ، بہت منباون ہےسپریم خدا سمجھ اور اتاہ ہے. وہ صرف گرو کے فضل کے ذریعے محسوس کیا جا سکتا ہے.خدا کی موجودگی ان لوگوں کے لئے نازل کی گئی ہے جن کو گرو کی تعلیم خوشگوار لگتی ہے. خود ابھیمانی افراد پتھر کی طرح ضد ہیں. ان کے ذہن میں کچھ بھی بُرائی کی تاریکی ہے ۔ سانپ صرف زہر بھی جب دودھ کے ساتھ کھلایا. اسی طرح مانموکہس تمام نیکی کے بدلے میں صرف بُرائی کے بدلے جاتے ہیں ۔ اے ‘ خدا ، مجھے گرو کے ساتھ متحد کرو تاکہ اس کے کلام کو پڑھنے سے میں اپنے کا زہر نکال سکتا ہوں ، جیسے ہی سانپ کی زہر ایک جڑی بوٹی پر چوس کی طرف سے ہٹا دیا جاتا ہے نانک گرو کا حلیم بندہ ہے ۔ مقدس جماعت میں ، اس کی تلخ نوعیت میٹھی اور خوشگوار ہو جاتا ہےخدا کے ساتھ یونین حاصل کرنے کے مقصد کے لئے ، میں نے مکمل طور پر گرو کو اپنے آپ کو ہتھیار ڈال دیا ہے. نیک سچا گرو نے میرے دل میں خدا کا نام دیا ہے ، اور اب میرا چہرہ اور پیشانی اچھی قسمت کے ساتھ ریڈیوٹنگ ہیں.گرو کی تعلیمات کے ذریعہ ، میں محبت کرتا ہوں خدا کے ایل کے لئے باخبر.
گھٹِ گھٹِ رمئیِیا رمت رام راءِ
گُر سبدِ گُرۄُ لِو لاگے ॥
ہءُ منُ تنُ دیوءُ کاٹِ گُرۄُ کءُ
میرا بھ٘رمُ بھءُ گُر بچنی بھاگے ॥2॥
انّدھِیارےَ دیِپک آنِ جلاۓ
گُر گِیانِ گُرۄُ لِو لاگے ॥
اگِیانُ انّدھیرا بِنسِ بِناسِئۄ
گھرِ وستُ لہی من جاگے ॥3॥
ساکت بدھِک مائِیادھاری
تِن جم جۄہنِ لاگے ॥
اُن ستِگُر آگےَ سیِسُ ن بیچِیا
اۄءِ آوہِ جاہِ ابھاگے ॥4॥
ہمرا بِنءُ سُنہُ پ٘ربھ ٹھاکُر
ہم سرݨِ پ٘ربھۄُ ہرِ ماگے ॥
جن نانک کی لج پاتِ گُرۄُ ہےَ
سِرُ بیچِئۄ ستِگُر آگے ॥5॥ 10 ॥ 24 ॥ 62 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 4॥
ہم اہنّکاری اہنّکار اگِیان متِ
گُرِ مِلِۓَ آپُ گوائِیا ॥
ہئُمےَ رۄگُ گئِیا سُکھُ پائِیا
دھنُ دھنّنُ گُرۄُ ہرِ رائِیا ॥1॥
رام گُر کےَ بچنِ ہرِ پائِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
میرےَ ہیِئرےَ پ٘ریِتِ رام راءِ کی
گُرِ مارگُ پنّتھُ بتائِیا ॥
میرا جیءُ پِنّڈُ سبھُ ستِگُر آگےَ
جِنِ وِچھُڑِیا ہرِ گلِ لائِیا ॥2॥
میرےَ انّتِر پ٘ریِتِ لگی دیکھن کءُ
گُرِ ہِردےَ نالِ دِکھائِیا ॥
سہج اننّدُ بھئِیا منِ مۄرےَ
گُر آگےَ آپُ ویچائِیا ॥3॥
ہم اپرادھ پاپ بہُ کیِنے
کرِ دُسٹی چۄر چُرائِیا ॥
اب نانک سرݨاگتِ آۓ
ہرِ راکھہُ لاج ہرِ بھائِیا ॥4॥ 11 ॥ 25 ॥ 63 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 4॥
گُرمتِ باجےَ سبدُ اناہدُ
گُرمتِ منۄُیا گاوےَ ॥
وڈبھاگی گُر درسنُ پائِیا
دھنُ دھنّنُ گُرۄُ لِو لاوےَ ॥1॥
گُرمُکھِ ہرِ لِو لاوےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
ہمرا ٹھاکُرُ ستِگُرُ پۄُرا
منُ گُر کی کار کماوےَ ॥
ہم ملِ ملِ دھۄوہ پاو گُرۄُ کے
جۄ ہرِ ہرِ کتھا سُناوےَ ॥2॥
ہِردےَ گُرمتِ رام رسائِݨُ
جِہوا ہرِ گُݨ گاوےَ ॥
من رسکِ رسکِ ہرِ رسِ آگھانے
پھِرِ بہُرِ ن بھۄُکھ لگاوےَ ॥3॥
کۄئی کرےَ اُپاو انیک بہُتیرے
بِنُ کِرپا نامُ ن پاوےَ ॥
جن نانک کءُ ہرِ کِرپا دھاری
متِ گُرمتِ نامُ د٘رِڑاوےَ ॥4॥ 12 ॥ 26 ॥ 64 ॥
راگُ گئُڑی ماجھ محلا 4॥
گُرمُکھِ جِنّدۄُ جپِ نامُ کرنّما ॥
متِ ماتا متِ جیءُ نامُ مُکھِ راما ॥
سنّتۄکھُ پِتا کرِ گُرُ پُرکھُ اجنما ॥
اگرچہ خُدا ہر دِل میں سرائیت ہے ، لیکن یہ صرف گرو کے کلام کے وسیلہ سے ہے جو کہ ایک باخبر ہے ۔ میں نے اپنے جسم اور ذہن کو گرو کو ہتھیار ڈال دیا ، کیونکہ گرو کی تعلیمات نے میرے شک اور خوف کو داسپاللاد کیا ہے. گرو ایک کے جاہل ذہن کی تاریکی میں الہی حکمت کا چراغ لائٹس ، اور گرو کی تعلیمات کے ذریعے ایک گرو کے لئے باخبر ہو جاتا ہے. جہالت کی تاریکی داسپاللاد ہے ، نام کا دولت دل کے اندر محسوس ہوتا ہے اور ذہن مایا کی نیند سے جاگ جاتا ہے ۔ بے اعتقاد کیناکس شکاریوں کی طرح ظالمانہ دل بن جاتے ہیں اور موت کے بھوت کی طرف سے ادیمیوں ہیں. وہ حقیقی گرو سے پہلے ان کی انا کو ہتھیار نہیں دیتے ، تو یہ بدقسمتی سے پیدائش اور موت کے ادوار میں تکلیف ہے. اے ‘ خُدا ، میرے آقا ، براہِ کرم میری دُعا کو سُن ، میں تیری پناہ کے لیے آیا ہوں اور تیرے نام سے تیری طرف بھیک مانگتی ہوں ۔ گرو میری عزت اور نانک کے اعزاز کا نجات دہندہ ہے ۔ میں مکمل طور پر حقیقی گرو پر ہتھیار ڈال دیا ہے جیسا کہ میں نے اپنے آپ کو فروخت کیا ہے. گرو کی تعلیمات کے بغیر ہم خود ابھیمانی رہتے ہیں اور ہماری عقل جاہل اور نفسانی درجات ہے ۔ لیکن گرو کو ملنے پر ، ہماری خود اعتمادی خاتمہ ہے. جب (گرو کے فضل سے) انا کا بیماری داسپاللاد ہے تو ہم امن حاصل کرتے ہیں ۔ لہذا ، میں نے مبارک کہا ہے کہ گرو-خدا ، کائنات کا بادشاہ ہے. گرو کی تعلیمات کے ذریعے ، میں نے خدا کو احساس کیا ہے. میرا دل خدا ، خود مختار بادشاہ ، اور گرو کے لئے محبت سے بھرا ہوا ہے ، مجھے راستہ اور اس کے ساتھ متحد کرنے کا راستہ دکھایا گیا ہے. میں نے اپنی روح اور جسم کو گرو پر ہتھیار ڈال دیا ، جس نے مجھے خدا کے ساتھ متحد کیا جس سے میں الگ کر دیا گیا تھا. میرے ذہن کے اندر خدا کو دیکھنا ترس تھا ، گرو نے اپنے دل میں خدا کے ساتھ رہنے کا انکشاف کیا. میرے ذہن میں ، بدیہی امن اور نعمتوں کی پیدا ہے ۔ اس لئے میں نے اپنے آپ کو گرو پر مکمل طور پر ہتھیار ڈال دیا ہے جیسا کہ میں نے اپنے آپ کو فروخت کیا ہے. میں نے بہت سے گناہوں اور برے کاموں کا ارتکاب کیا ہے اور ان کو چور کی طرح چھپا دیا ہے ۔ اب ، نانک آپ کی پناہ گاہ میں آیا ہے ، اے خُدا ، براہِ کرم میری تعظیم کو محفوظ کر جیسا کہ یہ آپ کو خوش کرے ۔ گرو کی تعلیمات کے ذریعے ، مسلسل الہی موسیقی کی دھن ایک کے دماغ میں ہل رکھتا ہے اور اس کے دماغ خدا کی تعریف گاتی ہیں. صرف ایک بہت ہی خوش قسمت شخص نے گرو کی مبارک نظر کو پسند کیا ، اور مبارک گرو ہے جو خدا کی محبت کو اٹونی کرنے کے لئے ایک حوصلہ افزائی کرتا ہے. یہ صرف گرو کی تعلیمات سے ہی ہے جو کہ خدا کی محبت کو اٹوناس ہے ۔ صرف کامل گرو میرا آقا ہے ، میرا من صرف گرو کی تعلیمات پر عمل کر رہا ہے ۔ میں اس گرو کی تعلیمات پر عاجزی کی پیروی کرتا ہوں جو خدا کے فضائل کو بیان ہے ۔ گرو کی تعلیمات کے ذریعے ، خُدا کے نام کی آب میرے ذہن میں دی گئی ہے ، اور میری زبان خُدا کی حمد کو گاتی ہے ۔ میرا دماغ خدا کے نام کے ذائقہ سے لطف اندوز کرکے مکمل طور پر ترپت ہے ، اور اب یہ دنیاوی خوشیوں کے لئے کوئی زیادہ خواہش نہیں ہے. یہاں تک کہ اگر کوئی خدا کی رحمت کے بغیر بہت سے کوششیں کرتا ہے تو ، کوئی نام نہیں حاصل کر سکتا. خدا نے نانک اور گرو کی تعلیمات کی حکمت کے ذریعے پوچھ گچھ پر رحم کیا ہے اس نے اپنے دماغ میں مضبوطی سے نام دیا ہے. اے میری جان ، گرو کی تعلیمات پر عمل کریں اور نام پر مراقبہ کا کام کریں ۔ آپ کی ماں کی طرح کی زندگی میں گرو دیا گیا عقل آپ کی مدد ہو اور خدا کا نام پڑھتا ہے. قناعت کریں کہ آپ کے باپ جیسی زندگی میں آپ کے رہنمائی کا اصول ہو اور وہ گرو کی تعلیمات پر اوتار جو کہ دائمی خُدا کا ہے ۔
وڈبھاگی مِلُ راما ॥1॥
گُرُ جۄگی پُرکھُ مِلِیا رنّگُ ماݨی جیءُ ॥
گُرُ ہرِ رنّگِ رتڑا سدا نِرباݨی جیءُ ॥
وڈبھاگی مِلُ سُگھڑ سُجاݨی جیءُ ॥
میرا منُ تنُ ہرِ رنّگِ بھِنّنا ॥2॥
آوہُ سنّتہُ مِلِ نامُ جپاہا ॥
وِچِ سنّگتِ نامُ سدا لےَ لاہا جیءُ ॥
کرِ سیوا سنّتا انّم٘رِتُ مُکھِ پاہا جیءُ ॥
مِلُ پۄُربِ لِکھِئڑے دھُرِ کرما ॥3॥
ساوݨِ ورسُ انّم٘رِتِ جگُ چھائِیا جیءُ ॥
منُ مۄرُ کُہُکِئڑا سبدُ مُکھِ پائِیا ॥
ہرِ انّم٘رِتُ وُٹھڑا مِلِیا ہرِ رائِیا جیءُ ॥
جن نانک پ٘ریمِ رتنّنا ॥4॥1॥ 27 ॥ 65 ॥
گئُڑی ماجھ محلا 4॥
آءُ سکھی گُݨ کامݨ کریِہا جیءُ ॥
مِلِ سنّت جنا رنّگُ ماݨِہ رلیِیا جیءُ ॥
گُر دیِپکُ گِیانُ سدا منِ بلیِیا جیءُ ॥
ہرِ تُٹھےَ ڈھُلِ ڈھُلِ مِلیِیا جیءُ ॥1॥
میرےَ منِ تنِ
پ٘ریمُ لگا ہرِ ڈھۄلے جیءُ ॥
مےَ میلے مِت٘رُ ستِگُرُ ویچۄلے جیءُ ॥
منُ دیواں سنّتا میرا پ٘ربھُ میلے جیءُ ॥
ہرِ وِٹڑِئہُ سدا گھۄلے جیءُ ॥2॥
وسُ میرے پِیارِیا وسُ میرے گۄوِدا
ہرِ کرِ کِرپا منِ وسُ جیءُ ॥
منِ چِنّدِئڑا پھلُ پائِیا میرے گۄوِنّدا
گُرُ پۄُرا ویکھِ وِگسُ جیءُ ॥
ہرِ نامُ مِلِیا سۄہاگݨی میرے گۄوِنّدا
منِ اندِنُ اندُ رہسُ جیءُ ॥
ہرِ پائِئڑا وڈبھاگیِئی میرے گۄوِنّدا
نِت لےَ لاہا منِ ہسُ جیءُ ॥3॥
ہرِ آپِ اُپاۓ ہرِ آپے ویکھےَ
ہرِ آپے کارےَ لائِیا جیءُ ॥
اِکِ کھاوہِ بخش تۄٹِ ن آوےَ
اِکنا فقا پائِیا جیءُ ॥
اِکِ راجے تختِ بہہِ نِت سُکھیِۓ
اِکنا بھِکھ منّگائِیا جیءُ ॥
سبھُ اِکۄ سبدُ ورتدا میرے گۄوِدا
جن نانک نامُ دھِیائِیا جیءُ ॥4॥2॥ 28 ॥ 66 ॥
گئُڑی ماجھ محلا 4॥
من ماہی من ماہی میرے گۄوِنّدا
ہرِ رنّگِ رتا من ماہی جیءُ ॥
ہرِ رنّگُ نالِ ن لکھیِۓَ میرے گۄوِدا
گُرُ پۄُرا الکھُ لکھاہی جیءُ ॥
ہرِ ہرِ نامُ پرگاسِیا میرے گۄوِنّدا
سبھ دالد دُکھ لہِ جاہی جیءُ ॥
ہرِ پدُ اۄُتمُ پائِیا میرے گۄوِنّدا
وڈبھاگی نامِ سماہی جیءُ ॥1॥
نیَݨی میرے پِیارِیا نیَݨی میرے گۄوِدا
کِنےَ ہرِ پ٘ربھُ ڈِٹھڑا نیَݨی جیءُ ॥
میرا منُ تنُ بہُتُ بیَراگِیا میرے گۄوِنّدا
ہرِ باجھہُ دھن کُملیَݨی جیءُ ॥
اس طرح میں اے ‘ خوش قسمت ایک, تم خدا کے ساتھ متحد ہو جائے گا. میں نے گرو سے ملاقات کی ہے ، جو خود خدا کے ساتھ متحد ہے ، اور گرو کے فضل سے میں نے خدا کی محبت کی نعمتوں سے لطف اندوز ہوں. گرو خدا کی محبت کے ساتھ حواریوں ہے اور ہمیش سے آزاد ہے. اے خوش قسمت ایک ، آپ کو بھی اس طرح کے ایک مکمل اور عقل مند گرو سے ملنا چاہئے. میرا من اور بدن خُدا کی محبت میں بھیگ ہے ، اے مقدسین ، ہمیں خُدا کے نام سے پیار عقیدت کے ساتھ مراقبہ کرنے دیں ۔ کتاب مقدس میں ، چلو نام کی دیرپا دولت کماتے ہیں. آئیں گرو کی تعلیمات پر عمل کریں ، اور نام کی مہکنا امرت میں حصہ لیں ۔ کے مطابق آپ کی پہلے سے مقرر قسمت خدا کے ساتھ متحد. برسات کے موسم) کے مہینے میں ، بارش پانی ہر جگہ اور مور کہار اور رقص کرتا ہے ، اسی طرح جب گرو کے لفظ کی آب مجھ میں بارش ہوتی ہے ، تو میں محسوس کرتا ہوں کہ میرا دماغ رقص ہے اور خدا کی تعریف کرتا ہے. نام کا آب من میں بارش ہوتا ہے اور قادرِ مطلق خُدا کے ساتھ اتحاد حاصل ہوتا ہے ۔ نانک خدا کی محبت سے حواریوں ہے ۔ میرے دوست آتے ہیں ، ہم خدا کے فضائل کو اپنے خیرات کے طور پر بنانے کی اجازت دیتے ہیں. آئیں مقدس جماعت کے مقدسین میں شامل ہوں اور خُدا کی محبت کی نعمتوں سے لطف اندوز ہوں ۔ ہمیں ہمیشہ اپنے من میں گرو کی حکمت کے چراغ کو روشن کرنے دیں ۔ اگر خدا ہم پر مہربان ہو تو ہم شکرگزاری کے ساتھ اس سے ملتے ہیں ۔ | | 1 | | میرے ذہن اور بدن میرے پیارے خُدا کی محبت کے باخبر ہیں ۔ میں چاہتا ہوں کہ حقیقی گرو ، میرے ثالث ، مجھے اپنے دوست کے ساتھ متحد کر سکتے ہیں ۔ میں اپنے دماغ کو اُن کفر کے لیے ہتھیار ڈال دونگا جو میرے خُدا کے ساتھ مُجھے متحد کر سکتے ہیں ۔ میں نے ہمیشہ خدا کے لئے اپنے آپ کو وقف. اے میرے محبوب اور کائنات کے مالک! رحم دکھا اور میرے دماغ کے اندر رہنے کے لئے آئے. اے ‘ کائنات کے میرا آقا ، آئینہ کامل گرو ، میرے ذہن کی خواہشات پوری ہوئی ہیں اور میں مکمل طور پر خوش ہوں. اے ‘ میرے خدا ، خدا کے نام کو سمجھتا ہے جو خوش قسمت روح دلہن ، ہمیشہ باہمی اور خوش ہے. اے ‘ میرے خدا, خوش قسمت روح دلہن نے آپ کے نام کی دولت کو وہاں کی طرف سے آپ کو احساس ہوا ہے جو, وہ مسلسل روحانی نعمتوں سے لطف اندوز کر رہے ہیں. اے میرے دوستوں ، خدا خود تمام مخلوق پیدا کرتا ہے ، وہ خود ان کے بعد دیکھتا ہے ، اور وہ خود کو مختلف کاموں میں تفویض. کچھ لامحدود نعمتیں سے نوازا جاتا ہے جو کبھی نہیں چلتا ہے ، جبکہ دوسروں کو صرف ایک مٹھی بھر ملتا ہے. اس کے فضل سے بہت سے لوگ بادشاہ کے طور پر تخت پر بیٹھ جاتے ہیں اور مسلسل خوشیوں سے لطف اندوز ہوتے ہیں ، جبکہ دوسروں کو جو وہ بھیک دیتا ہے. اے میری کائنات کا مالک ہے ۔ صرف اس کا حکم ہر جگہ ، اور شائستہ نانک یاد آپ کے نام پر ہے. اے ‘ میرے خدا ، جو آپ کے سے نوازا جاتا ہے وہ احساس کرتا ہے کہ آپ اس کے دماغ میں رہائش رکھتے ہیں اور اس کا دماغ آپ کی محبت کے ساتھ حواریوں رہتا ہے. اے میرے پیارے خُدا ، تُو ہمیشہ ہمارے ساتھ ہے ، لیکن ہم اِس کو سمجھ نہیں سکتے ۔ یہ صرف کامل گرو ہے جو ہمیں جاننے میں مدد دیتا ہے ، بالاتر خدا. اے ‘ کائنات کے میرا آقا ، جن کے ذہن میں آپ کا نام روشن ہے ، ان کے تمام مصائب اور غم ہٹا دیا جاتا ہے. اے ‘ کائنات کا میرا آقا ، جو اچھی قسمت سے ، خدا کے ساتھ یونین کی سپریم روحانی ریاست حاصل کریں ، نام میں ضم رہے. || 1 | | اے ‘ کائنات کے میرے محبوب ماسٹر ، کیا کسی نے کبھی اس کی آنکھوں سے دیکھا ہے ؟ اے ‘ کائنات کے میرا آقا, آپ کے بغیر میں علیحدگی کا درد محسوس کر رہا ہوں, اور میں ایک علیحدہ نوجوان دلہن کی طرح دور بہہ رہا ہوں.

سنّت جنا مِلِ پائِیا میرے گۄوِدا
میرا ہرِ پ٘ربھُ سجݨُ سیَݨی جیءُ ॥
ہرِ آءِ مِلِیا جگجیِونُ میرے گۄوِنّدا
مےَ سُکھِ وِہاݨی ریَݨی جیءُ ॥2॥
مےَ میلہُ سنّت میرا ہرِ پ٘ربھُ سجݨُ
مےَ منِ تنِ بھُکھ لگائیِیا جیءُ ॥
ہءُ رہِ ن سکءُ بِنُ دیکھے میرے پ٘ریِتم
مےَ انّترِ بِرہُ ہرِ لائیِیا جیءُ ॥
ہرِ رائِیا میرا سجݨُ پِیارا
گُرُ میلے میرا منُ جیِوائیِیا جیءُ ॥
میرےَ منِ تنِ آسا پۄُریِیا میرے گۄوِنّدا
ہرِ مِلِیا منِ وادھائیِیا جیءُ ॥3॥
واری میرے گۄوِنّدا واری میرے پِیارِیا
ہءُ تُدھُ وِٹڑِئہُ سد واری جیءُ ॥
میرےَ منِ تنِ پ٘ریمُ پِرنّم کا میرے گۄوِدا
ہرِ پۄُنّجی راکھُ ہماری جیءُ ॥
ستِگُرُ وِسٹُ میلِ میرے گۄوِنّدا
ہرِ میلے کرِ ریَباری جیءُ ॥
ہرِ نامُ دئِیا کرِ پائِیا میرے گۄوِنّدا
جن نانکُ سرݨِ تُماری جیءُ ॥4॥3॥ 29 ॥ 67 ॥
گئُڑی ماجھ محلا 4॥
چۄجی میرے گۄوِنّدا چۄجی میرے پِیارِیا
ہرِ پ٘ربھُ میرا چۄجی جیءُ ॥
ہرِ آپے کان٘ہُ اُپائِدا میرے گۄوِدا
ہرِ آپے گۄپی کھۄجی جیءُ ॥
ہرِ آپے سبھ گھٹ بھۄگدا میرے گۄوِنّدا
آپے رسیِیا بھۄگی جیءُ ॥
ہرِ سُجاݨُ ن بھُلئی میرے گۄوِنّدا
آپے ستِگُرُ جۄگی جیءُ ॥1॥
آپے جگتُ اُپائِدا میرے گۄوِدا
ہرِ آپِ کھیلےَ بہُ رنّگی جیءُ ॥
اِکنا بھۄگ بھۄگائِدا میرے گۄوِنّدا
اِکِ نگن پھِرہِ ننّگ ننّگی جیءُ ॥
آپے جگتُ اُپائِدا میرے گۄوِدا
ہرِ دانُ دیوےَ سبھ منّگی جیءُ ॥
بھگتا نامُ آدھارُ ہےَ میرے گۄوِنّدا
ہرِ کتھا منّگہِ ہرِ چنّگی جیءُ ॥2॥
ہرِ آپے بھگتِ کرائِدا میرے گۄوِنّدا
ہرِ بھگتا لۄچ منِ پۄُری جیءُ ॥
آپے جلِ تھلِ ورتدا میرے گۄوِدا
روِ رہِیا نہی دۄُری جیءُ ॥
ہرِ انّترِ باہرِ آپِ ہےَ میرے گۄوِدا
ہرِ آپِ رہِیا بھرپۄُری جیءُ ॥
ہرِ آتم رامُ پسارِیا میرے گۄوِنّدا
ہرِ ویکھےَ آپِ حدۄُری جیءُ ॥3॥
ہرِ انّترِ واجا پئُݨُ ہےَ میرے گۄوِنّدا
ہرِ آپِ وجاۓ تِءُ واجےَ جیءُ ॥
ہرِ انّترِ نامُ نِدھانُ ہےَ میرے گۄوِنّدا
گُر سبدی ہرِ پ٘ربھُ گاجےَ جیءُ ॥
آپے سرݨِ پوائِدا میرے گۄوِنّدا
ہرِ بھگت جنا راکھُ لاجےَ جیءُ ॥
اے ‘ میرے پیار کرنے والے خُدا ، اپنے عقیدت مندوں کے ساتھ ، میں نے آپ کو ، میرے ساتھی اور بہترین دوست کو محسوس کیا ہے ۔ اے ‘ میرا آقا ، اس لمحے سے میں نے آپ کو احساس کیا ہے ، کائنات کی زندگی ، میری زندگی کی رات امن میں گزر رہی ہے. | | 2 | | اے خُدا کے ساتھ عقیدت مند ، براہِ کرم مجھے اپنے دوست خُدا کے ساتھ متحد کر ، میرے ذہن اور بدن اُس کے لیے تڑپ ہیں ۔ میں روحانی طور پر اپنے پیارے خُدا کو آئینہ بغیر زندہ نہیں رہ سکتا ، میں اپنے دل میں اُس کی علیحدگی کے نکالو کا شکار ہوں ۔ خُدا ، بادشاہ ، میرا پیارا اور بہترین دوست ہے ۔ گرو نے مجھے اس کے ساتھ متحد کیا ہے اور میری جان گئی ہے ۔ اے ‘ میرے خدا ، اب جب تُو نے مجھ سے ملاقات کی ، میرے دل کی ساری خواہشات پوری ہو گئی ہیں ، اور میرے ذہن میں اب خوشی کے گیت گاتی ہیں ۔ اے میرے پیارے خُدا ، میں تیرے لیے وقف ہوں ، ہاں میں ہمیشہ تیرے لیے وقف ہوں ۔ اے ‘ میرا آقا ، میرا من اور بدن تیری محبت سے بھرا ہوا ہے ، براہِ کرم میری محبت کے اِس دولت کو محفوظ رکھ ۔ اے ‘ کائنات کے میرا آقا ، براہِ کرم مجھے حقیقی گرو کے ساتھ متحد کر ، جو اُس کی راہنمائی کے وسیلہ سے مجھے تیرے ساتھ متحد کرے گا ۔ اے ‘ کائنات کے میرے شاندار خُدا ، حیرت انگیز طور پر آپ کی شاندار ڈرامے ہیں ۔ جی ہاں ، میرا عزیز خدا عجائبات پیدا کرنے کا مالک ہے. خدا نے خود خدا کرشن پیدا کیا اور وہ خود مالکمید ہے جو اس کی کوشش ہے. ہر دل میں وسعت کی طرف سے ، میرے خدا خود راواشر اور انجویر ہے. خدا دانا اور معصوم ہے ، وہ خود سچا گرو اور یوگی ہے. یہ خدا ہے جو خود کو دنیا بناتا ہے ، اور وہ خود کو بہت سے طریقوں سے ادا کرتا ہے. کچھ ، وہ بہت امیر ہوتا ہے کہ وہ تمام قسم کی خوشیوں سے لطف اندوز کرتے ہیں ، جبکہ دوسروں کو ننگے ، غریب کے غریب افراد کے ارد گرد گھومتے ہیں. میرے خدا نے خود اس کائنات کو پیدا کیا ہے ، سب اس کی طرف سے بھیک مانگنا ، اور وہی صرف وہی ہے جو سب کو تحفہ دیتا ہے. میرا آقا اس کی عقیدت مندوں کی حمایت ہے ۔ خدا کی طرف سے وہ صرف اپنی شاندار تعریف کے لئے بھیک مانگتی ہے. || 2 | | خُدا نے خود کو اُس کی عبادت کرنے کے لیے اپنے عقیدت کو متاثر کیا ، اور وہ خود اپنی خواہشات کو پورا کرتی ہے ۔ میرا خدا کائنات کا خود پانی اور زمین کو پرمیاٹانگ ہے ۔ وہ وسعت ہے ، وہ کسی سے دُور نہیں ہے ۔ خدا خود انسانوں کے اندر اور باہر بھی ہے ، وہ خود مکمل طور پر ہر جگہ پرمیاٹانگ ہے. تمام وسعت خدا نے پوری دنیا کے کھیل کو پھیلا دیا ہے ، وہ سب کے قریب ہے اور وہ خود سب کو دیکھ بھال کرتا ہے. خدا نے خود کو ایک موسیقی کے آلے کی طرح سانس لینے کی طاقت فراہم کی ہے اور یہ خدا خود خواہشات کے طور پر ان کی سانس کے طور پر. تمام مخلوقات میں خدا کے نام کا خزانہ موجود ہے ، لیکن یہ صرف گرو کے کلام کے ذریعے ہے ، یہ ظاہر ہو جاتا ہے ۔ خدا خود کو اپنی پناہ کی تلاش کرتا ہے ، اور پھر وہ اپنے اعزاز کو بچاتا ہے.

وڈبھاگی مِلُ سنّگتی میرے گۄوِنّدا
جن نانک نام سِدھِ کاجےَ جیءُ ॥4॥4॥ 30 ॥ 68 ॥
گئُڑی ماجھ محلا 4॥
مےَ ہرِ نامےَ ہرِ بِرہُ لگائی جیءُ ॥
میرا ہرِ پ٘ربھُ مِتُ مِلےَ
سُکھُ پائی جیءُ ॥
ہرِ پ٘ربھُ دیکھِ جیِوا میری مائی جیءُ ॥
میرا نامُ سکھا ہرِ بھائی جیءُ ॥1॥
گُݨ گاوہُ سنّت جیءُ
میرے ہرِ پ٘ربھ کیرے جیءُ ॥
جپِ گُرمُکھِ نامُ جیءُ بھاگ وڈیرے جیءُ ॥
ہرِ ہرِ نامُ جیءُ
پ٘ران ہرِ میرے جیءُ ॥
پھِرِ بہُڑِ ن بھوجل پھیرے جیءُ ॥2॥
کِءُ ہرِ پ٘ربھ ویکھا
میرےَ منِ تنِ چاءُ جیءُ ॥
ہرِ میلہُ سنّت جیءُ
منِ لگا بھاءُ جیءُ ॥
گُر سبدی پائیِۓَ ہرِ پ٘ریِتم راءُ جیءُ ॥
وڈبھاگی جپِ ناءُ جیءُ ॥3॥
میرےَ منِ تنِ وڈڑی
گۄوِنّد پ٘ربھ آسا جیءُ ॥
ہرِ میلہُ سنّت جیءُ
گۄوِد پ٘ربھ پاسا جیءُ ॥
ستِگُر متِ نامُ سدا پرگاسا جیءُ ॥
جن نانک پۄُرِئڑی منِ آسا جیءُ ॥4॥5॥ 31 ॥ 69 ॥
گئُڑی ماجھ محلا 4॥
میرا بِرہی نامُ مِلےَ تا جیِوا جیءُ ॥
من انّدرِ انّم٘رِتُ گُرمتِ ہرِ لیِوا جیءُ ॥
منُ ہرِ رنّگِ رتڑا
ہرِ رسُ سدا پیِوا جیءُ ॥
ہرِ پائِئڑا منِ جیِوا جیءُ ॥1॥
میرےَ منِ تنِ
پ٘ریمُ لگا ہرِ باݨُ جیءُ ॥
میرا پ٘ریِتمُ مِت٘رُ ہرِ پُرکھُ سُجاݨُ جیءُ ॥
گُرُ میلے سنّت ہرِ سُگھڑُ سُجاݨُ جیءُ ॥
ہءُ نام وِٹہُ قُرباݨُ جیءُ ॥2॥
ہءُ ہرِ ہرِ سجݨُ
ہرِ میِتُ دسائی جیءُ ॥
ہرِ دسہُ سنّتہُ جی
ہرِ کھۄجُ پوائی جیءُ ॥
ستِگُرُ تُٹھڑا دسے ہرِ پائی جیءُ ॥
ہرِ نامے نامِ سمائی جیءُ ॥3॥
مےَ ویدن پ٘ریمُ ہرِ بِرہُ لگائی جیءُ ॥
گُر سردھا پۄُرِ انّم٘رِتُ مُکھِ پائی جیءُ ॥
ہرِ ہۄہُ دئِیالُ ہرِ نامُ دھِیائی جیءُ ॥
جن نانک ہرِ رسُ پائی جیءُ ॥4॥6॥ 20 ॥ 18 ॥ 32 ॥ 70 ॥
محلا 5 راگُ گئُڑی گُیاریری چئُپدے
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
کِن بِدھِ کُسلُ ہۄت میرے بھائی ۔ ॥
کِءُ پائیِۓَ ہرِ رام سہائی ॥1॥ رہاءُ ॥
کُسلُ ن گ٘رِہِ میری سبھ مائِیا ॥
اۄُچے منّدر سُنّدر چھائِیا ॥
جھۄُٹھے لالچِ جنمُ گوائِیا ॥1॥
نانک اور خوش قسمتی سے ۔ مقدس جماعت میں شمولیت اختیار کریں اور خدا کے نام پر غور کریں ، یہ نام کے ذریعے ہے کہ زندگی کا مقصد حاصل کیا جاتا ہے. خدا نے میرے اندر خدا کے نام کے لئے ایک ترس پرتیاروپت ہے. اب ، میں امن پر محسوس کرتا ہوں جب میں اپنے دوست ، خدا کا احساس کرتا ہوں. اے ‘ میری ماں ، میں روحانی طور پر صرف اپنے خدا کو محسوس کر کے زندہ رہ جاتا ہوں ۔ خُدا کا نام میرا واحد دوست اور بھائی ہے ۔ اے ، معزز مقدسین ، میرے خُدا کی حمد کرتے ہیں ۔ محبت گرو کے ذریعے نام پر مراقبہ ، ایک بہت خوش قسمت ہو جاتا ہے. خدا کا نام اب میری زندگی کی حمایت بن گیا ہے. ایسی حمایت کے ساتھ ، میرے لئے پیدائش اور موت کا کوئی دور نہیں ہوگا. میرے دماغ اور جسم اس کے لئے خواہش. میں اپنے خدا کو کیسے دیکھ سکتا ہوں ؟ اے عزیز مقدسین ، براہِ کرم مُجھے خُدا کے ساتھ متحد کر ، میرا من اُس کو ترس ہے ۔ یہ گرو کی تعلیمات کے ذریعے ہے کہ ہم اپنے پیارے خدا کا احساس کر سکتے ہیں. اے بہت خوش قسمت ، خدا کے نام کا گانا. میرے دماغ کے اندر ، خدا کے لئے ایسی بہت بڑی چاہت ہے. اے عزیز مقدسین ، مجھے خُدا کا احساس کر جو میرے اندر رہتا ہے ۔ گرو کی تعلیمات کی پیروی کرکے ، فانی کا من ہمیشہ نام کے ساتھ روشن رہتا ہے ۔ اے ‘ نانک ، جو گرو کی تعلیمات پر عمل کرتا ہے ، خدا کے ساتھ یونین کے لئے اس کی خواہش پوری ہو جاتی ہے. میں روحانی طور پر زندہ رہ گیا ہوں اگر میں خُدا کے نام سے برکت پاتا ہوں جس سے میں الگ ہو گیا ہوں ۔ نام کے مہکنا امرت میرے دل میں ہے ، لیکن صرف گرو کی تعلیمات کے ذریعے میں اسے حاصل کر سکتے ہیں. میرا ذہن خدا کی محبت کے ساتھ حواریوں ہے ، اور میں ہمیشہ نام کے آب کا حصہ. میں نے اپنے ذہن کے اندر خدا کو احساس ہوا ہے ، اور اس وجہ سے میں روحانی طور پر زندہ ہوں. خدا کی محبت کا تیر میرے ذہن اور جسم چھید گیا ہے. میرے محبوب ، میرے سب سے اچھے دوست ، خدا بہت عقلمند ہے ، یہ صرف گرو ہے جو زیرک خدا کے ساتھ ایک کو یکجا کرتا ہے. میں اپنے آپ کو خدا کے نام سے وقف کرتا ہوں ۔ اے عزیز مقدسین ، میں تم سے اپنے دوست ، خدا کے مقام سے پوچھ گچھ کرتا ہوں ۔ جی ہاں ، مجھے خدا کے راستے کے بارے میں بتائیں ، میں اس کے لئے سب کو تلاش کر رہا ہوں. صرف خدا کا احساس کر سکتے ہیں جب سچا گرو مہربان بن جاتا ہے اور مجھے اس کی رہنمائی کرتا ہے ، اور صرف اس کے بعد ، میں خدا کے نام پر مراقبہ کرکے نام میں ضم کر سکتے ہیں. میں خدا کی محبت سے علیحدگی کا درد اور خدا کے ساتھ یونین کے لئے ترس ویلانگ ہے. اے خُدا ، براہِ کرم رحم کو ظاہر کر ، تاکہ میں پیار تیرے نام پر مراقبہ کروں اور اے ‘ نانک ، میں تیرے نام کا آب حاصل کر سکوں ۔ ایک خدا. سچا گرو کے فضل سے احساس ہوا: اے میرے بھائی ، کس طرح ایک روحانی تجربہ کر سکتے ہیں ؟ خُدا ، ہماری مدد اور مدد کیسے کر سکتا ہے ؟ اور درختوں کی طرف سے گھیر لیا گیا بلند و بالا کے ساتھ خوبصورت رنگوں کو پھینک. جس نے ان دنیاوی مال کو یہ خیال دیا تھا کہ اس انسانی جنم کو جھوٹے لالچ میں برباد کر دی گئی ہے ۔

ہستی گھۄڑے دیکھِ وِگاسا ॥
لشکر جۄڑے نیب خواسا ॥
گلِ جیوڑی ہئُمےَ کے پھاسا ॥2॥
راجُ کماوےَ دہ دِس ساری ॥
ماݨےَ رنّگ بھۄگ بہُ ناری ॥
جِءُ نرپتِ سُپنےَ بھیکھاری ॥3॥
ایکُ کُسلُ مۄ کءُ ستِگُرۄُ بتائِیا ॥
ہرِ جۄ کِچھُ کرے
سُ ہرِ کِیا بھگتا بھائِیا ॥
جن نانک ہئُمےَ مارِ سمائِیا ॥4॥
اِن بِدھِ کُسل ہۄت میرے بھائی ۔ ॥
اِءُ پائیِۓَ ہرِ رام سہائی ॥1॥ رہاءُ دۄُجا ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
کِءُ بھ٘رمیِۓَ بھ٘رمُ کِس کا ہۄئی ۔ ॥
جا جلِ تھلِ مہیِئلِ روِیا سۄئی ॥
گُرمُکھِ اُبرے منمُکھ پتِ کھۄئی ॥1॥
جِسُ راکھےَ آپِ رامُ دئِیارا ॥
تِسُ نہی دۄُجا کۄ پہُچنہارا ॥1॥ رہاءُ ॥
سبھ مہِ ورتےَ ایکُ اننّتا ॥
تا تۄُنّ سُکھِ سۄءُ ہۄءِ اچِنّتا ॥
اۄہُ سبھُ کِچھُ جاݨےَ جۄ ورتنّتا ॥2॥
منمُکھ مُۓ جِن دۄُجی پِیاسا ॥
بہُ جۄنی بھوہِ دھُرِ کِرتِ لِکھِیاسا ॥
جیَسا بیِجہِ تیَسا کھاسا ॥3॥
دیکھِ درسُ منِ بھئِیا وِگاسا ॥
سبھُ ندری آئِیا ب٘رہمُ پرگاسا ॥
جن نانک کی ہرِ پۄُرن آسا ॥4॥2॥ 71 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
کئی جنم بھۓ کیِٹ پتنّگا ॥
کئی جنم گج میِن کُرنّگا ॥
کئی جنم پنّکھی سرپ ہۄئِئۄ ॥
کئی جنم ہیَور ب٘رِکھ جۄئِئۄ ॥1॥
مِلُ جگدیِس مِلن کی بریِیا ॥
چِرنّکال اِہ دیہ سنّجریِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
کئی جنم سیَل گِرِ کرِیا ॥
کئی جنم گربھ ہِرِ کھرِیا ॥
کئی جنم ساکھ کرِ اُپائِیا ॥
لکھ چئُراسیِہ جۄنِ بھ٘رمائِیا ॥2॥
سادھسنّگِ بھئِئۄ جنمُ پراپتِ ॥
کرِ سیوا بھجُ ہرِ ہرِ گُرمتِ ॥
تِیاگِ مانُ جھۄُٹھُ ابھِمانُ ॥
جیِوت مرہِ درگہ پروانُ ॥3॥
جۄ کِچھُ ہۄیا سُ تُجھ تے ہۄگُ ॥
اورُ ن دۄُجا کرݨےَ جۄگُ ॥
تا مِلیِۓَ جا لیَہِ مِلاءِ ॥
کہُ نانک ہرِ ہرِ گُݨ گاءِ ॥4॥3॥ 72 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
کرم بھۄُمِ مہِ بۄئہُ نامُ ॥
پۄُرن ہۄءِ تُمارا کامُ ॥
پھل پاوہِ مِٹےَ جم ت٘راس ॥
نِت گاوہِ ہرِ ہرِ گُݨ جاس ॥1॥
ہرِ ہرِ نامُ انّترِ اُرِ دھارِ ॥
سیِگھر کارجُ لیہُ سوارِ ॥1॥ رہاءُ ॥
اپنے پ٘ربھ سِءُ ہۄہُ ساودھانُ ॥
تا تۄُنّ درگہ پاوہِ مانُ ॥
وہ اپنے ہاتھیوں اور گھوڑوں کی نظر میں خوشی محسوس کرتا ہے ، وہ ایک وسیع فوج اسسیمبلاس ہے اور مشیروں اور شاہی بندوں کو رکھتا ہے. یہ سب دراصل انا کی نووساس ہیں جو وہ اپنی گردن کے گرد رکھتا ہے ۔ اس کی سلطنت تمام دس سمتوں میں توسیع کر سکتی ہے, وہ بہت سے خوشیوں اور بہت سے خواتین کی کمپنی حاصل. لیکن ان تمام خوشیوں کے درمیان ، وہ اس کے خواب میں ایک خدا بننے کے طور پر صرف ایک بادشاہ کا شکار. حقیقی گرو نے مجھے حقیقی خوشی کا راز نازل کیا ہے ۔ راز ہے کہ جو کچھ بھی خدا کرتا ہے, یہ خدا کے عقیدت مند لگتا ہے. اے ‘ نانک ، جو انا کو قتل کر کے خود خدا میں مل گیا ہے ۔ اے ‘ میرے بھائی, یہ خوشی سے خدا کے حکم کو قبول کرنے کی طرف سے ایک نعمت حاصل کرتا ہے کس طرح ہے. یہ خدا ، ہمارے حقیقی دوست کا احساس کرنے کا راستہ ہے. ایک شک کیوں ہونا چاہئے ؟ اس بارے میں شک کیا ہونا چاہئے ؟ جب ایک مضبوطی کا خیال ہے کہ ایک ہی خدا پانی ، زمین اور آسمان وسعت ہے. گرو کے پیروکاروں (جو اس طرح کے شکوک و شبہات سے بڑھ رہے ہیں) دنیاوی دولت سے محفوظ ہیں ، لیکن خود کو اپنی طرف سے ان کے اعزاز سے محروم ہیں. وہ جو مہربان خُدا کی طرف سے حفاظت کی جاتی ہے ، کوئی اور اُس کے حریف نہیں ہو سکتا ۔ ایک لامحدود خدا تمام مخلوق کو سرائیت ہے ، اس وجہ سے ، فکر نہ کرو اور ایک پرامن زندگی بسر. خدا جو کچھ دنیا میں ہو رہا ہے جانتا ہے. دنیاوی دولت کی خواہش ، خود ابھیمانی افراد روحانی موت کے ساتھ مرتے رہتے ہیں ۔ ان کے مقرر ہونے کی قسمت کے مطابق ، وہ بہت سے پیدائش کے ذریعے گھومتے ہیں. وہ جو کچھ وہ پلانٹ کھاتے ہیں ان کے اعمال کے مطابق اجروثواب حاصل کرتے ہیں ۔ جس کا من ہر چیز میں خدا آئینہ پر خوش ہو جاتا ہے ۔ وہ ہر جگہ خُدا کی روشنی پرمیاٹانگ دیکھتا ہے ۔ اے نانک ، خدا اس کے ساتھ ہر ایک آرزو کو پورا کرتا ہے ۔ اے بشر ، کئی پیدائش کے لئے آپ کیڑا یا ایک کیڑے بن گئے. کئی بار آپ کو ایک ہاتھی کے طور پر پیدا کیا گیا تھا, ایک مچھلی یا ہرن. بہت سے پیدائش میں آپ ایک پرندوں یا ایک سانپ تھے ، کئی کی پیدائش میں آپ کو ایک گھوڑے یا ایک بیل کے طور پر یوکاد تھے. اے بشر ، خدا کے ساتھ متحد ہونے کی کوشش کریں ؛ انسانی زندگی صرف خُدا کے ساتھ متحد ہونے کا واحد موقع ہے ۔ صرف طویل وقت کے بعد آپ کو اس انسانی جسم موصول ہوئی ہے. کئی کی پیدائش کے لئے آپ کو پتھر اور پہاڑوں میں تبدیل کر دیا گیا. بہت سے اوتاروں میں ، آپ کو رحم خود میں ہلاک کر. کئی پیدائش میں آپ کو ایک درخت کے طور پر اضافہ کیا گیا تھا. اس طرح آپ کو لاکھوں پرجاتیوں میں گھومنے کے لئے بنایا گیا تھا. تُو نے یہ انسانی زندگی حاصل کی ہے ۔ مقدس جماعت میں شمولیت اختیار کریں. گرو کی تعلیمات کے ذریعے ، خدا کے نام پر غور کرنا اور انسانیت کی بے لوث خدمت انجام دیتا ہے. تکبر ، باطل اور تکبر چھوڑ کر ۔ آپ کو اب بھی زندہ ہیں جبکہ آپ کی انا کو تباہ کر دیا جاتا ہے تو, آپ کو خدا کی عدالت میں قبول کیا جائے گا. اے خُدا ، جو بھی ہوتا ہے تیری مرضی کے مطابق ہے ۔ کوئی اور کچھ کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے. اے خُدا ، ہم صرف آپ کے ساتھ متحد ہو سکتے ہیں اگر آپ اپنے آپ کو متحد کرتے ہیں ، صرف تب ہم خُدا کی حمد کر سکتے ہیں ، نانک کہتے ہیں ۔ اے میرے دوست ، انسانی جسم کے میدان میں نام کی بیج بونا. اس طرح آپ کی زندگی کا مقصد مکمل ہو جائے گا ۔ اگر آپ مسلسل خدا کی تعریف کرتے ہیں تو آپ کو موت کے خوف سے رہائی کی شکل میں انعام ملے گا. اپنے دل میں خُدا کے نام کو ، اور جلدی سے انسانی زندگی کا مقصد حاصل کرنا ۔ ہمیشہ خدا کی عقیدت کی عبادت کرنے کے لئے تیار رہیں, صرف اس کے بعد, آپ خدا کی عدالت میں اعزاز حاصل کریں گے.

اُکتِ سِیاݨپ سگلی تِیاگُ ॥
سنّت جنا کی چرݨی لاگُ ॥2॥
سرب جیء ہہِ جا کےَ ہاتھِ ॥
کدے ن وِچھُڑےَ سبھ کےَ ساتھِ ॥
اُپاو چھۄڈِ گہُ تِس کی اۄٹ ॥
نِمکھ ماہِ ہۄوےَ تیری چھۄٹِ ॥3॥
سدا نِکٹِ کرِ تِس نۄ جاݨُ ॥
پ٘ربھ کی آگِیا ستِ کرِ مانُ ॥
گُر کےَ بچنِ مِٹاوہُ آپُ ॥
ہرِ ہرِ نامُ نانک جپِ جاپُ ॥4॥4॥ 73 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
گُر کا بچنُ سدا ابِناسی ॥
گُر کےَ بچنِ کٹی جم پھاسی ॥
گُر کا بچنُ جیء کےَ سنّگِ ॥
گُر کےَ بچنِ رچےَ رام کےَ رنّگِ ॥1॥
جۄ گُرِ دیِیا سُ من کےَ کامِ ॥
سنّت کا کیِیا ستِ کرِ مانِ ॥1॥ رہاءُ ॥
گُر کا بچنُ اٹل اچھید ॥
گُر کےَ بچنِ کٹے بھ٘رم بھید ॥
گُر کا بچنُ کتہُ ن جاءِ ॥
گُر کےَ بچنِ ہرِ کے گُݨ گاءِ ॥2॥
گُر کا بچنُ جیء کےَ ساتھ ॥
گُر کا بچنُ اناتھ کۄ ناتھ ॥
گُر کےَ بچنِ نرکِ ن پوےَ ॥
گُر کےَ بچنِ رسنا انّم٘رِتُ روےَ ॥3॥
گُر کا بچنُ پرگٹُ سنّسارِ ॥
گُر کےَ بچنِ ن آوےَ ہارِ ॥
جِسُ جن ہۄۓ آپِ ک٘رِپال ॥
نانک ستِگُر سدا دئِیال ॥4॥5॥ 74 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
جِنِ کیِتا ماٹی تے رتنُ ॥
گربھ مہِ راکھِیا جِنِ کرِ جتنُ ॥
جِنِ دیِنی سۄبھا وڈِیائی ॥
تِسُ پ٘ربھ کءُ آٹھ پہر دھِیائی ॥1॥
رمئیِیا رینُ سادھُ جن پاوءُ ॥
گُر مِلِ اپُنا خصمُ دھِیاوءُ ॥1॥ رہاءُ ॥
جِنِ کیِتا مۄُڑ تے بکتا ॥
جِنِ کیِتا بیسُرت تے سُرتا ॥
جِسُ پرسادِ نوےَ نِدھِ پائی ॥
سۄ پ٘ربھُ من تے بِسرت ناہی ॥2॥
جِنِ دیِیا نِتھاوے کءُ تھانُ ॥
جِنِ دیِیا نِمانے کءُ مانُ ॥
جِنِ کیِنی سبھ پۄُرن آسا ॥
سِمرءُ دِنُ ریَنِ ساس گِراسا ॥3॥
جِسُ پ٘رسادِ مائِیا سِلک کاٹی ॥
گُر پ٘رسادِ انّم٘رِتُ بِکھُ کھاٹی ॥
کہُ نانک اِس تے کِچھُ ناہی ॥
راکھنہارے کءُ سالاحی ॥4॥6॥ 75 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
تِس کی سرݨِ ناہی بھءُ سۄگُ ॥
اُس تے باہرِ کچھۄُ ن ہۄگُ ॥
تجی سِیاݨپ بل بُدھِ بِکار ॥
داس اپنے کی راکھنہار ॥1॥
جپِ من میرے رام رام رنّگِ ॥
گھرِ باہرِ تیرےَ سد سنّگِ ॥1॥ رہاءُ ॥
تِس کی ٹیک منےَ مہِ راکھُ ॥
اپنے تمام دلائل اور چالاکی کو چھوڑ دیں ، اور عاجزی سے ساینٹل افراد کی تعلیمات پر عمل کریں ۔ ایک ، جس کے کنٹرول میں تمام مخلوق ہیں ، جو ان سے الگ نہیں ہیں اور ہمیشہ ان سب کے ساتھ رہتا ہے. اپنی تمام کوششوں کو چھوڑ کر اور خدا کی حمایت کی تلاش; ایک فوری طور پر آپ مایا کے بانڈز سے آزاد کیا جائے گا. جان لو کہ خُدا ہمیشہ ہاتھ میں ہے ۔ خدا کے حکم کو ابدی طور پر قبول کریں ۔ گرو کی تعلیمات کے ذریعے آپ کی خود اعتمادی کا خاتمہ. اے نانک ، محبت عقیدت کے ساتھ خدا کے نام پر غور. گرو کا کلام ابدی اور ابدی ہے ۔ گرو کے لفظ کے ذریعے سے ایک کو موت کی پھسری سے بچا لیا جاتا ہے. گرو کا لفظ ہمیشہ روح کے ساتھ رہتا ہے. گرو کے کلام کے ذریعے سے ایک خدا کی محبت کے ساتھ حواریوں ہے. جو بھی تعلیمات گرو دیتا ہے ، اس کے دماغ کے لئے مفید ہے. جو بھی گرو کرتا ہے ، وہ سچ کو قبول کرتی ہے. گرو کا کلام ابدی اور معصوم ہے ۔ گرو کے کلام کے ذریعے ، شک اور تعصب داسپاللاد ہیں. گرو کا لفظ کبھی بھی برباد نہیں ہوتا ۔ گرو کے کلام کے ذریعے سے ایک خدا کی تعریف کرتے ہیں. گرو کا لفظ ہمیشہ روح کے ساتھ رہتا ہے. گرو کا کلام حمایت سے کم کی حمایت ہے. گرو کے کلام کے بعد ، ایک جہنم میں نہیں ڈالا جاتا ہے (ایک مصیبت میں مبتلا نہیں ہے). گرو کے لفظ کے ذریعے ایک کے نام کا مہکنا امرت حاصل. گرو کے لفظ کے ذریعے ایک دنیا میں جانا جاتا ہے. گرو کے کلام کے بعد ایک زندگی کا کھیل ختم نہیں ہوتا. جس پر خدا خود مہربان ہو ۔ اے ‘ نانک ، سچا گرو ہمیشہ اس پر مہربان ہے ۔ وہ جس نے میرے زیور جیسے انمول جسم کو خاک سے پیدا کیا ، وہ جس نے مجھے ماں کے پیٹ میں محفوظ رکھا ۔ وہ جو مجھے عزت اور جلال عطا کرتا ہے ، میں اُس کو ہر وقت پیار کرنے والی عقیدت کے ساتھ یاد رکھتا ہوں ۔ || 1 | | اے خُدا ، مجھے ساینٹل لوگوں کی فروتن خدمت کے ساتھ برکت دے ۔ جس نے مجھے ایک بے خبر احمق کو تبدیل کر دیا جس نے مجھے ایک جاہل شخص کے لئے ایک جاہل آدمی کو تبدیل کیا جس کے فضل کے وسیلہ سے میں نے دنیا کے تمام نو خزانہ وصول کیے ہیں ، کہ اللہ تعالٰی کبھی میرے ذہن سے باہر نہیں جاتا ۔ وہ جس نے پناہ گاہ کے لئے پناہ دی ، وہ جو عزت کے بغیر ایک کو عزت بخشی ، وہ ، جو میری تمام خواہش پوری کی ، میں پیار کرتا تھا ، اس دن اور رات کو ہر دم اور نوالہ کے ساتھ یاد کرتے ہیں ۔ وہ جس کے فضل سے میری دنیاوی دولت کا میرا بانڈ بند ہو گیا ہے ، گرو کے فضل کی طرف سے ، زہریلا مایا جو امرت کی طرح چکھا ہے ، اب زہر کی طرح تلخ ذائقہ ہے. نانک کہتے ہیں کہ ، کسی کی اپنی کوششوں پر کچھ بھی نہیں کر سکتا. اُس کے فضل سے ، میں خُدا کی حمد کرتا ہوں ، نجات دہندہ ۔ اُس کی پناہ میں کوئی خوف اور غم نہیں ۔ اس کی مرضی سے باہر کچھ نہیں ہو سکتا ، میں نے اپنے تمام چالاکی ، طاقت اور بری عقل منحرف ہے. خُدا اپنے وقار کے اعزاز کا محافظ ہے ۔ ‘ میرے ذہن, محبت کے ساتھ خدا پر غور, وہ ہمیشہ کے اندر اور بغیر دونوں کے ساتھ ہے. (اے میرے دوست) ، آپ کے دماغ میں ہمیشہ اس کی حمایت پر منحصر ہے.

گُر کا سبدُ انّم٘رِت رسُ چاکھُ ॥
اورِ جتن کہہُ کئُن کاج ۔ ॥
کرِ کِرپا راکھےَ آپِ لاج ॥2॥
کِیا مانُکھ کہہُ کِیا زۄرُ ۔ ॥
جھۄُٹھا مائِیا کا سبھُ سۄرُ ॥
کرݨ کراونہار سُیامی ॥
سگل گھٹا کے انّترجامی ॥3॥
سرب سُکھا سُکھُ ساچا ایہُ ॥
گُر اُپدیسُ منےَ مہِ لیہُ ॥
جا کءُ رام نام لِو لاگی ॥
کہُ نانک سۄ دھنّنُ وڈبھاگی ॥4॥7॥ 76 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
سُݨِ ہرِ کتھا اُتاری میَلُ ॥
مہا پُنیِت بھۓ سُکھ سیَلُ ॥
وڈےَ بھاگِ پائِیا سادھسنّگُ ॥
پارب٘رہم سِءُ لاگۄ رنّگُ ॥1॥
ہرِ ہرِ نامُ جپت جنُ تارِئۄ ॥
اگنِ ساگرُ گُرِ پارِ اُتارِئۄ ॥1॥ رہاءُ ॥
کرِ کیِرتنُ من سیِتل بھۓ ॥
جنم جنم کے کِلوِکھ گۓ ॥
سرب نِدھان پیکھے من ماہِ ॥
اب ڈھۄُڈھن کاہے کءُ جاہِ ۔ ॥2॥
پ٘ربھ اپُنے جب بھۓ دئِیال ॥
پۄُرن ہۄئی سیوک گھال ॥
بنّدھن کاٹِ کیِۓ اپنے داس ॥
سِمرِ سِمرِ سِمرِ گُݨتاس ॥3॥
ایکۄ منِ ایکۄ سبھ ٹھاءِ ॥
پۄُرن پۄُرِ رہِئۄ سبھ جاءِ ॥
گُرِ پۄُرےَ سبھُ بھرمُ چُکائِیا ॥
ہرِ سِمرت
نانک سُکھُ پائِیا ॥4॥8॥ 77 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
اگلے مُۓ سِ پاچھےَ پرے ॥
جۄ اُبرے سے بنّدھِ لکُ کھرے ॥
جِہ دھنّدھے مہِ اۄءِ لپٹاۓ ॥
اُن تے دُگُݨ دِڑی اُن ماۓ ॥1॥
اۄہ بیلا کچھُ چیِتِ ن آوےَ ॥
بِنسِ جاءِ تاہۄُ لپٹاوےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
آسا بنّدھی مۄُرکھ دیہ ॥
کام ک٘رۄدھ لپٹِئۄ اسنیہ ॥
سِر اُپرِ ٹھاڈھۄ دھرم راءِ ॥
میِٹھی کرِ کرِ بِکھِیا کھاءِ ॥1॥
ہءُ بنّدھءُ ہءُ سادھءُ بیَرُ ॥
ہمری بھۄُمِ کئُݨُ گھالےَ پیَرُ ۔ ॥
ہءُ پنّڈِتُ ہءُ چتُرُ سِیاݨا ॥
کرݨیَہارُ ن بُجھےَ بِگانا ॥2॥
اپُنی گتِ مِتِ آپے جانےَ ॥
کِیا کۄ کہےَ کِ آکھِ وکھانےَ ۔ ॥
جِتُ جِتُ لاوہِ تِتُ تِتُ لگنا ॥
اپنا بھلا سبھ کاہۄُ منّگنا ॥3॥
سبھ کِچھُ تیرا تۄُنّ کرݨیَہارُ ॥
انّتُ ناہی کِچھُ پاراوارُ ॥
داس اپنے کءُ دیِجےَ دانُ ॥
کبہۄُ ن وِسرےَ
نانک نامُ ॥5॥9॥ 78 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
انِک جتن نہی ہۄت چھُٹارا ॥
بہُتُ سِیاݨپ آگل بھارا ॥
ہرِ کی سیوا نِرمل ہیت ॥
پ٘ربھ کی درگہ سۄبھا سیت ॥1॥
اور گرو کے کلام کے مہکنا امرت کی نعمتوں سے لطف اندوز. (روگردانی خدا) آپ کی دوسری کوششوں کا استعمال کرتے ہیں جب ، اس کی رحمت کو ظاہر کرتے ہیں ، خدا خود اپنے وقار کی عزت کی حفاظت کرتا ہے. مجھے بتاؤ ، کیا طاقت انسانوں کے پاس ہے ؟ مایا کی تمام تر ہنگامہ ، جھوٹی اور مختصر زندگی کا ہے ۔ یہ خدا کرتا ہے اور سب کچھ کیا جاتا ہے جو ہے. وہ تمام دلوں کا راز جانتا ہے ۔ تمام خوشیوں کے ، سپریم اور ابدی خوشی ہے. گرو کی تعلیمات دل میں دی گئی رکھنے کے لئے. ایک جو خدا کے نام کی محبت کے لئے باخبر ہے. نانک کا کہنا ہے کہ ، مبارک وہ شخص ہے جو خدا کی حمد کے لیے سُننے پر ہے ، جو کی گندگی سے آزاد ہو گئے تھے ، نرمل بن جاتے ہیں اور تمام آرام اور امن حاصل کرتے ہیں. عظیم خوش قسمتی سے ، وہ سنتوں کی کمپنی کے ساتھ نوازا گیا. اور خدا کی محبت سے حواریوں تھے ۔ گرو نے اس دیوتا کو بچا لیا ہے جو خدا کے نام پر مراقبہ کر رہا ہے ۔ گرو نے دنیاوی خواہشات کی آگ کے سمندر بھر میں تیر کرنے میں مدد کی ہے. وہ لوگ جن کے ذہنوں خدا کی تعریف کرتے ہوئے پرسکون ہو گئے ، بے شمار شرح پیدائش کے ان کے گناہوں کو دھو رہے تھے. انہوں نے دیکھا اور ان کے دماغ میں تمام نو خزانے کی خوشی کا لطف اٹھایا. لہذا ، وہ کہیں اور کیوں تلاش کرنا چاہئے ؟ جب خدا اپنی عقیدت مندوں کی قسم بن گیا ، تو اس کے عقیدت مندوں کی خدمت مکمل ہو گئی ۔ اپنی دنیاوی وابستگی کے ساتھ ان کی خدمت میں یوکاد ۔ خدا پر مراقبہ کرتے ہوئے, فضائل کے خزانہ, اس میں عقیدت مندوں کو ضم. انہوں نے کہا کہ ایک ہی اپنے دل اور ہر جگہ وسعت ہے ہے کہ احساس. یہ کامل خُدا ہر جگہ پرمیاٹانگ ہے ۔ ایک جس کے شکوک و شبہات کامل گرو کی طرف سے داسپاللاد کیا گیا ہے. اے نانک ، خدا پر مراقبہ کرکے ، اس نے امن حاصل کیا ہے ۔ ہمارے آباؤ اجداد نے دنیاوی دولت کو پیچھے چھوڑ دیا اور پہلے ہی بھول گیا ہے ۔ وہ جو اب بھی زندہ ہیں وہ منٹگمری دنیاوی دولت میں بالاستحکام مصروف ہیں ۔ دنیاوی دولت کا حصول جس میں باپ دادا مصروف رہے تھے ، ان کی مصروف رہے کے ساتھ ساتھ ایک ہی تعاقب میں ۔ اس وقت بھی جب وہ ہر چیز کو چھوڑ دیں اور اس سے دور ، اس کے آباؤ اجداد کی طرح ، یہاں تک کہ فانی کے ذہن میں نہیں آئے. اس کی بجائے وہ دنیاوی مال کو چمٹ رکھتا ہے جو کہ خراب ہے ۔ بے وقوف انسان کا بدن دنیاوی خواہشات کے باعث پابند ہے ۔ وہ ہوس ، غصے اور جذباتی وابستگی میں الجھا رہتا ہے. ایک کے سر کے اوپر موت کا بھوت کھڑا ہوتا ہے (ایک کسی بھی وقت مر سکتا ہے) اسے میٹھی ہونے کے لئے یقین رکھتے ہیں ، ایک انسان جو دنیاوی دولت کو جمع اور چکھنے رکھتا ہے. اُس کی انا میں وہ کہتا ہے: “میں اپنے دشمن کے ساتھ اپنا اکاؤنٹ ہمت گا” جو میری زمین پر پاؤں قائم کرنا چاہتا ہوں ؟ میں جانتا ہوں ، میں ہوشیار اور عقل مند ہوں. جاہل خالق کو نہیں سمجھتا. خدا خود اپنی ریاست اور حد جانتا ہے. کوئی کیا کہہ سکتا ہے ؟ کس طرح کسی کو اس کی وضاحت کر سکتے ہیں ؟ اسے ایک ایسا کام کرنے کی ہے جو اسے تفویض کیا گیا ہے ۔ ، ہر کوئی آپ سے اپنی فلاح کے لیے بھیک مانگتی ہے ۔ اے خُدا ، سب کُچھ تیرا ہے ، تُو خالق ہے ۔ آپ کے فضائل و اختیارات محدود ہیں ۔ اے خُدا ، براہِ کرم اپن کو برکت دے ۔

من میرے گہُ ہرِ نام کا اۄلا ॥
تُجھےَ ن لاگےَ تاتا جھۄلا ॥1॥ رہاءُ ॥
جِءُ بۄہِتھُ بھےَ ساگر ماہِ ॥
انّدھکار دیِپک دیِپاہِ ॥
اگنِ سیِت کا لاہسِ دۄُکھ ॥
نامُ جپت منِ ہۄوت سۄُکھ ॥2॥
اُترِ جاءِ تیرے من کی پِیاس ॥
پۄُرن ہۄوےَ سگلی آس ॥
ڈۄلےَ ناہی تُمرا چیِتُ ॥
انّم٘رِت نامُ جپِ گُرمُکھِ میِت ۔ ॥3॥
نامُ ائُکھدھُ سۄئی جنُ پاوےَ ॥
کرِ کِرپا جِسُ آپِ دِواوےَ ॥
ہرِ ہرِ نامُ جا کےَ ہِردےَ وسےَ ॥
دۄُکھُ دردُ تِہ نانک نسےَ ॥4॥ 10 ॥ 79 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
بہُتُ دربُ کرِ منُ ن اگھانا ॥
انِک رۄُپ دیکھِ نہ پتیِیانا ॥
پُت٘ر کلت٘ر اُرجھِئۄ جانِ میری ॥
اۄہ بِنسےَ اۄءِ بھسمےَ ڈھیری ॥1॥
بِنُ ہرِ بھجن دیکھءُ بِللاتے ॥
دھ٘رِگُ تنُ دھ٘رِگُ دھنُ
مائِیا سنّگِ راتے ॥1॥ رہاءُ ॥
جِءُ بِگاری کےَ سِرِ دیِجہِ دام ॥
اۄءِ خصمےَ کےَ گ٘رِہِ اُن دۄُکھ سہام ॥
جِءُ سُپنےَ ہۄءِ بیَست راجا ॥
نیت٘ر پسارےَ تا نِرارتھ کاجا ॥2॥
جِءُ راکھا کھیت اۄُپرِ پراۓ ॥
کھیتُ خصم کا راکھا اُٹھِ جاۓ ॥
اُسُ کھیت کارݨِ راکھا کڑےَ ॥
تِس کےَ پالےَ کچھۄُ ن پڑےَ ॥3॥
جِس کا راجُ تِسےَ کا سُپنا ॥
جِنِ مائِیا دیِنی تِنِ لائی ت٘رِسنا ॥
آپِ بِناہے آپِ کرے راسِ ॥
نانک پ٘ربھ آگےَ عرداسِ ॥4॥ 11 ॥ 80 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
بہُ رنّگ مائِیا بہُ بِدھِ پیکھی ॥
قلم کاگد سِیانپ لیکھی ॥
مہر ملۄُک ہۄءِ دیکھِیا خان ॥
تا تے ناہی منُ ت٘رِپتان ॥1॥
سۄ سُکھُ مۄ کءُ سنّت بتاوہُ ॥
ت٘رِسنا بۄُجھےَ منُ ت٘رِپتاوہُ ॥1॥ رہاءُ ॥
اسُ پون ہستِ اسواری ॥
چۄیا چنّدنُ سیج سُنّدرِ ناری ॥
نٹ ناٹِک آکھارے گائِیا ॥
تا مہِ منِ سنّتۄکھُ ن پائِیا ॥2॥
تختُ سبھا منّڈن دۄلیِچے ॥
سگل میوے سُنّدر باگیِچے ॥
آکھیڑ بِرتِ راجن کی لیِلا ॥
منُ ن سُہیلا پرپنّچُ ہیِلا ॥3॥
کرِ کِرپا سنّتن سچُ کہِیا ॥
سرب سۄُکھ اِہُ آننّدُ لہِیا ॥
سادھسنّگِ ہرِ کیِرتنُ گائیِۓَ ॥
کہُ نانک وڈبھاگی پائیِۓَ ॥4॥
جا کےَ ہرِ دھنُ سۄئی سُہیلا ॥
پ٘ربھ کِرپا تے سادھسنّگِ میلا ॥1॥ رہاءُ دۄُجا ॥ 12 ॥ 81 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
اے میرے ذہن میں ، خدا کے نام کی حمایت کے لئے تنگ رکھو ، تاکہ یہ بھی نہیں کہ معمولی درد آپ کو پہنچتی. جیسا کہ ایک خوفناک سمندر میں ، ایک جہاز ڈوبنے سے ایک کو بچاتا ہے ، لیمپ اندھیرے سے منور ہے ، اور آگ کو سردی کا درد دور کرتا ہے ، اسی طرح ، دماغ کے نام پر مراقبہ کے باعث محبت سے پرامن ہو جاتا ہے. دنیوی دولت کے لئے آپ کے دماغ کی تڑپ ہٹا دی جائے گی ، اور آپ کی تمام امیدوں پوری ہو جائیں گی ۔ آپ کا من دنیاوی مال کی ججکنا نہ کرے گا ۔ اے ‘ میرے دوست, گرو کے کلام کے بعد مہکنا نام پر غور. صرف وہی شخص جو اپنے نام کا علاج (سب کے لئے علاج) حاصل کرتا ہے ، رحم دکھا دیتا ہے ، جسے خدا نے اسے گرو سے حاصل کرنے میں مدد دی ہے ۔ جس میں سے ایک دل خدا کا نام رہتا ہے ، اے نانک ، اس کے تمام درد اور دکھوں کو ختم کر دیا جاتا ہے ۔ بہت دولت حاصل کرنے کے بعد بھی ذہن ترپت نہیں ہے ۔ اے میرے ذہن میں ، خدا کے نام کی حمایت کے لئے تنگ رکھو ، تاکہ یہ بھی نہیں کہ معمولی درد آپ کو پہنچتی. جیسا کہ ایک خوفناک سمندر میں ، ایک جہاز ڈوبنے سے ایک کو بچاتا ہے ، لیمپ اندھیرے سے منور ہے ، اور آگ کو سردی کا درد دور کرتا ہے ، اسی طرح ، دماغ کے نام پر مراقبہ کے باعث محبت سے پرامن ہو جاتا ہے. دنیوی دولت کے لئے آپ کے دماغ کی تڑپ ہٹا دی جائے گی ، اور آپ کی تمام امیدوں پوری ہو جائیں گی ۔ آپ کا من دنیاوی مال کی ججکنا نہ کرے گا ۔ اے ‘ میرے دوست, گرو کے کلام کے بعد مہکنا نام پر غور. صرف وہی شخص جو اپنے نام کا علاج (سب کے لئے علاج) حاصل کرتا ہے ، رحم دکھا دیتا ہے ، جسے خدا نے اسے گرو سے حاصل کرنے میں مدد دی ہے ۔ جس میں سے ایک دل خدا کا نام رہتا ہے ، اے نانک ، اس کے تمام درد اور دکھوں کو ختم کر دیا جاتا ہے ۔ بہت دولت حاصل کرنے کے بعد بھی ذہن ترپت نہیں ہے ۔ بے شمار خوبصورتی پر گھوم ، ذہن مطمئن نہیں ہے. ایک اپنے بچوں اور بیوی میں ملوث رہتا ہے ، یقین ہے کہ وہ اس سے تعلق رکھتے ہیں. وہ مال فنا ہو جائے گا اور وہ رشتہ داروں کو راکھ میں کم کیا جائے گا ۔ وہ جو خُدا پر مراقبہ کے بغیر رہتے ہیں ، میں اُن کو اُن کو دیکھ کر دیکھتا ہوں ۔ جو لوگ دنیوی دولت کی محبت میں مصروف رہے ہیں وہ ان کے جسم اور لعنت ان کا مال ہے ۔ یہ ایک بندوا مزدور کی طرف سے کیا جا رہا ہے پیسے کے بیگ کی طرح ہے ، پیسے اپنے مالک کے گھر میں جاتا ہے ، اور مزدور صرف بوجھ لے جانے کے درد کا شکار ہے. (اس کی صورت حال اس شخص کی طرح ہے) جو اس کے خواب میں بادشاہ بن جاتا ہے ، لیکن جب وہ اپنی آنکھوں کو کھولتا ہے ، تو وہ دیکھتا ہے کہ یہ سب بیکار تھا. ایک چوکیدار کے طور پر صرف ایک دوسرے کی فصلوں کی نگرانی کرتا ہے, کٹائی پر, فصل کے مالک کے ساتھ رہتا ہے اور چوکیدار روانہ. چوکیدار دوسرے کی فصل کا شکار ہے. لیکن پھر بھی ، آخر میں وہ گھر خالی ہاتھ جاتا ہے. وہ جس کی بادشاہی اس کائنات نے ہمیں دنیاوی خوشیوں کا خواب بھی عطا کیا ہے ۔ جس نے اسے دیا ہے. (تقدیر کی بنیاد پر) وہ اپنے آپ کو مایا میں کچھ انناہالاٹیس ہیں اور انہیں روحانی طور پر اور دوسروں کے ساتھ اس کا نام برکت دیتا ہے اور انسانی زندگی کے مقصد کو پورا کرتا ہے ۔ اے ‘ نانک ، ہمیں ہمیشہ تحفہ نام کے لئے خدا سے دعا کرنی چاہئے. میں نے مایا کو بہت سے طریقوں سے لوگوں کی بہت سی صورتیں دیکھی ہیں ۔ بہت سے لوگوں نے مایا کے مختلف طریقوں سے حکمت سوایاد کے الفاظ لکھے ہیں ۔ بہت سے لوگ ایک رہنما ، چیف ، یا بادشاہ بننے کی کوشش کی ہے لیکن ان میں سے کوئی بھی کسی کے ذہن کو مطمئن نہیں ہے. اے کے مقدسین ، براہِ کرم مُجھے رُوحانی نعمتوں کے بارے میں بتا ۔ جو مایا کے لیے میرے کو بجھانے اور میرے دماغ کو مطمئن کرے گا ۔ بہت سے لوگ فاسٹ گھوڑوں اور ہاتھیوں (مہنگی ویہاکالس) پر سواری کا تجربہ رکھتے ہیں ، بہت سے قسم کے خوشبو اور بستر میں خوبصورت خواتین کی کمپنی ، جادوگر کے ڈرامے اور ان کے گیتوں کو سن کر. لیکن ان دنیاوی خوشیوں میں بھی ذہن میں قناعت کو نہیں ملا ۔ تخت ، شاہی عدالتوں ، سجاوٹ ، مہنگا قالین ، ہر قسم کے پھل اور خوبصورت باغات ، شکار اور برم کی حوصلہ افزائی ، ان میں سے کوئی بھی ذہن میں حقیقی خوشی نہیں دیتا اور یہ ثابت ہوتا ہے کہ. ان کی شفقت میں ، مقدسین نے مجھے سچا مشورہ دیا ، کہ یہ روحانی نعمت ہے جو تمام آرام کا ذریعہ ہے ، صرف مقدس جماعت میں خدا کی تعریف کے ذریعے حاصل کی جاتی ہے ۔ نانک کہتے ہیں کہ ، خدا کی حمد کو گانا کرنے کا یہ تحفہ صرف خوش قسمتی سے حاصل ہوتا ہے. جو خدا کے نام کی دولت رکھتا ہے وہ صحیح معنوں میں امن ہے ۔ یہ صرف خدا کے فضل کی طرف سے ہے کہ ایک مقدس جماعت میں شامل ہے.

پ٘راݨی جاݨےَ اِہُ تنُ میرا ॥
بہُرِ بہُرِ اُیاہۄُ لپٹیرا ॥
پُت٘ر کلت٘ر گِرست کا پھاسا ॥
ہۄنُ ن پائیِۓَ رام کے داسا ॥1॥
کون سُ بِدھِ
جِتُ رام گُݨ گاءِ ॥
کون سُ متِ
جِتُ ترےَ اِہ ماءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
جۄ بھلائی سۄ بُرا جانےَ ॥
ساچُ کہےَ سۄ بِکھےَ سمانےَ ॥
جاݨےَ ناہی جیِت ارُ ہار ॥
اِہُ ولیوا ساکت سنّسار ॥2॥
جۄ ہلاہل سۄ پیِوےَ بئُرا ॥
انّم٘رِتُ نامُ جانےَ کرِ کئُرا ॥
سادھسنّگ کےَ ناہی نیرِ ॥
لکھ چئُراسیِہ بھ٘رمتا پھیرِ ॥3॥
ایکےَ جالِ پھہاۓ پنّکھی ॥
رسِ رسِ بھۄگ کرہِ بہُ رنّگی ॥
کہُ نانک جِسُ بھۓ ک٘رِپال ॥
گُرِ پۄُرےَ تا کے کاٹے جال ॥4॥ 13 ॥ 82 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
تءُ کِرپا تے مارگُ پائیِۓَ ॥
پ٘ربھ کِرپا تے نامُ دھِیائیِۓَ ॥
پ٘ربھ کِرپا تے بنّدھن چھُٹےَ ॥
تءُ کِرپا تے ہئُمےَ تُٹےَ ॥1॥
تُم لاوہُ تءُ لاگہ سیو ॥
ہم تے
کچھۄُ ن ہۄوےَ دیو ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
تُدھُ بھاوےَ تا گاوا باݨی ॥
تُدھُ بھاوےَ تا سچُ وکھاݨی ॥
تُدھُ بھاوےَ تا ستِگُر مئِیا ॥
سرب سُکھا پ٘ربھ تیری دئِیا ॥2॥
جۄ تُدھُ بھاوےَ سۄ نِرمل کرما ॥
جۄ تُدھُ بھاوےَ سۄ سچُ دھرما ॥
سرب نِدھان گُݨ تُم ہی پاسِ ॥
تۄُنّ صاحِبُ سیوک عرداسِ ॥3॥
منُ تنُ نِرملُ ہۄءِ ہرِ رنّگِ ॥
سرب سُکھا پاوءُ ستسنّگِ ॥
نامِ تیرےَ رہےَ منُ راتا ॥
اِہُ کلِیاݨُ نانک کرِ جاتا ॥4॥ 14 ॥ 83 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
آن رسا جیتے تےَ چاکھے ॥
نِمکھ ن ت٘رِسنا تیری لاتھے ॥
ہرِ رس کا تۄُنّ چاکھہِ سادُ ॥
چاکھت ہۄءِ رہہِ بِسمادُ ॥1॥
انّم٘رِتُ رسنا پیءُ پِیاری ۔ ॥
اِہ رس راتی ہۄءِ ت٘رِپتاری ॥1॥ رہاءُ ॥
ہے جِہوے تۄُنّ رام گُݨ گاءُ ॥
نِمکھ نِمکھ ہرِ ہرِ ہرِ دھِیاءُ ॥
آن ن سُنیِۓَ کتہۄُنّ جائیِۓَ ॥
سادھسنّگتِ وڈبھاگی پائیِۓَ ॥2॥
آٹھ پہر جِہوے آرادھِ ॥
پارب٘رہم ٹھاکُر آگادھِ ॥
ایِہا اۄُہا سدا سُہیلی ॥
ہرِ گُݨ گاوت رسن امۄلی ॥3॥
بنسپتِ مئُلی پھل پھُل پیڈے ॥
اِہ رس راتی بہُرِ ن چھۄڈے ॥
آن ن رس کس لوےَ ن لائی ॥
کہُ نانک گُر بھۓ ہےَ سہائی ॥4॥ 15 ॥ 84 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
منُ منّدرُ تنُ ساجی بارِ ॥
فانی اس جسم کو اپنے طور پر دعویٰ کرتا ہے ۔ پھر اور پھر ، اس نے اسے نتیجے ان کے بچوں ، بیوی اور گھر کے معاملات کے ساتھ الجھا ، وہ خدا کا دیوتا نہیں ہو سکتا. وہ راستہ کیا ہے جس کی طرف سے خدا کی تعریف کو گانا شروع کر سکتا ہے ؟ یہ کیا ہے کہ مندرجہ ذیل کی تعلیم مایا کے بانڈز سے محفوظ ہو سکتی ہے ؟ وہ کام جو اپنی بھلائی کے لیے ہے ، وہ سوچتا ہے کہ بُرائی ۔ اگر کوئی اسے سچ بتاتا ہے تو وہ اس پر زہر لگا دیتا ہے ۔ وہ یہ بھی نہیں سمجھتا کہ جس کام نے اسے زندگی کا کھیل جیت لیا ہے اور جو اسے کھو دے گا ۔ یہ بے اعتقاد کیناکس کی دنیا میں زندگی کا راستہ ہے. احمق مایا کا مہلک زہر پیتا ہے ، جبکہ وہ مہکنا نام تلخ ہونے کا یقین رکھتا ہے ۔ وہ مقدسوں کی جماعت کے نزدیک بھی نہیں جاتا ۔ اور لاکھوں کی پیدائش کے ذریعے کھو دیا. ایک جال میں پھنسے ہوئے پرندوں کی طرح ، خدا نے مایا میں انسانوں کو پھنس دیا ہے. دنیاوی خوشیوں میں ڈوب کر ، وہ بہت سے طریقوں سے کھیل رہے ہیں. نانک کہتے ہیں کہ ، جس پر خدا قسم بن گیا ہے ، کامل گرو نے دنیاوی انٹراپمانتس کی اپنی بانڈز کو کاٹ دیا ہے ۔ اے خُدا ، تیرے فضل سے ، ہم خُدا کے فضل کے وسیلہ سے جینے کے راستباز راستے کا احساس کرتے ہیں ، ہم نام پر مراقبہ کرتے ہیں ۔ خدا کے فضل سے ، ہم مایا کے بانڈز سے جاری کیے گئے ہیں ۔ تیرے فضل سے ، انانیت خاتمہ ہے ۔ اے خُدا ، اگر آپ ہمیں برکت دیتے ہیں ، تو ہم آپ کی عقیدت کی عبادت میں مشغول ہوتے ہیں ۔ اے ‘ میری انلاگہٹینر ، ہمارے اپنے طور پر ہم کچھ نہیں کر سکتے ہیں. اے خدا ، اگر یہ آپ کو خوش کرتا ہے ، تو میں آپ کی تعریف کے گیت گانا سکتا ہوں. اگر یہ آپ کو خوش کرتا ہے تو ، میں ابدی نام پڑھ سکتا ہوں. صرف جب یہ آپ کو خوش, ہم سچے گرو کا فضل حاصل. اے خدا ، تمام امن آپ کی مہربانی سے آتا ہے ۔ اے خُدا ، جو کچھ بھی آپ کو خوش کرتا ہے ، وہ نرمل کا کام ہے ۔ جو کچھ آپ کو خوشی ہے وہ سچا ایمان ہے ۔ تمام خزانہ اور تمام فضائل آپ کے ساتھ ہیں. تُو میرا آقا ہے ، اور تیرے خادم کی دُعا صرف آپ سے پہلے ہے ۔ میرے جسم اور دماغ آپ کی محبت میں نرمل اور خالص ہو سکتا ہے. میں ساینٹل افراد کی جماعت میں تمام خوشیوں کو تلاش کر سکتا ہوں. میرا من ہمیشہ تیری محبت کے ساتھ حواریوں رہ سکتا ہے ۔ نانک اس کے سمجھتی ہے ۔ (اے میری زبان), تمام نزیکوں, نام کے علاوہ آپ چکھنے والے ہیں, آپ کو ایک لمحے کے لئے بھی اپنی خواہشات ترپت نہیں ہے. لیکن اگر آپ خدا کے نام کی آب کا مزہ چکھو تو اسے چکھنے پر ووندرسٹروکک اور حیران ہوگا ۔ اے عزیز محبوب زبان ، نام کے مہکنا امرت میں پئیں ۔ اس شاندار جوہر کے ساتھ حواریوں ، آپ مطمئن ہوں گے. اے میری زبان خدا کی شاندار تعریف کرتے ہیں ۔ ہر ایک اور فوری طور پر خدا پر مراقبہ. نام کے سوا کچھ نہ سنیں اور مقدس جماعت کے سوا کہیں بھی نہیں جاتے. لیکن سنتوں کی کمپنی صرف عظیم خوش قسمتی سے حاصل کی جاتی ہے. اے ‘ میری زبان ، ہمیشہ محبت پر مراقبہ ، اتاہ ، سپریم آقا-خدا. یہاں اور آخرت ، تم ہمیشہ کے لئے خوش ہو جائے گا. اے ‘ میری زبان ، خدا کے فضائل کی جاپ سے ، آپ انمول بن جائیں گے ۔ ایک ہر قسم کے پودوں ، پھلوں اور بلوم میں پھولوں کو دیکھ سکتا ہے. لیکن حواریوں نام کے اس امرت کے ساتھ ، ایک دوسرے کے ساتھ کسی اور دنیاوی ذائقہ کے لئے کبھی نہیں چھوڑ دیں گے. ذہن ایک مندر (خدا کے گھر) کی طرح ہے ، اور جسم اس کے ارد گرد تعمیر ایک باڑ کی طرح ہے.

اِس ہی مدھے بستُ اپار ॥
اِس ہی بھیِترِ سُنیِئت ساہُ ॥
کونُ باپاری جا کا اۄُہا وِساہُ ॥1॥
نام رتن کۄ کۄ بِئُہاری ॥
انّم٘رِت بھۄجنُ کرے آہاری ॥1॥ رہاءُ ॥
منُ تنُ ارپی سیو کریِجےَ ॥
کون سُ جُگتِ جِتُ کرِ بھیِجےَ ॥
پاءِ لگءُ تجِ میرا تیرےَ ॥
کونُ سُ جنُ جۄ سئُدا جۄرےَ ॥2॥
محلُ ساہ کا کِن بِدھِ پاوےَ ۔ ॥
کون سُ بِدھِ جِتُ بھیِترِ بُلاوےَ ॥
تۄُنّ وڈ ساہُ
جا کے کۄٹِ وݨجارے ॥
کونُ سُ داتا لے سنّچارے ॥2॥
کھۄجت کھۄجت نِج گھرُ پائِیا ॥
امۄل رتنُ ساچُ دِکھلائِیا ॥
کرِ کِرپا جب میلے ساہِ ॥
کہُ نانک گُر کےَ ویساہِ ॥4॥ 16 ॥ 85 ॥
گئُڑی محلا 5 گُیاریری ॥
ریَݨِ دِنسُ رہےَ اِک رنّگا ॥
پ٘ربھ کءُ جاݨےَ سد ہی سنّگا ॥
ٹھاکُر نامُ کیِئۄ اُنِ ورتنِ ॥
ت٘رِپتِ اگھاونُ ہرِ کےَ درسنِ ॥1॥
ہرِ سنّگِ راتے من تن ہرے ॥
گُر پۄُرے کی سرنی پرے ॥1॥ رہاءُ ॥
چرݨ کمل آتم آدھار ॥
ایکُ نِہارہِ آگِیاکار ॥
ایکۄ بنجُ ایکۄ بِئُہاری ॥
اورُ ن جانہِ بِنُ نِرنّکاری ॥2॥
ہرکھ سۄگ دُہہۄُنّ تے مُکتے ॥
سدا الِپتُ جۄگ ارُ جُگتے ॥
دیِسہِ سبھ مہِ سبھ تے رہتے ॥
پارب٘رہم کا اۄءِ دھِیانُ دھرتے ॥3॥
سنّتن کی مہِما کون وکھانءُ ۔ ॥
اگادھِ بۄدھِ کِچھُ مِتِ نہی جانءُ ॥
پارب٘رہم مۄہِ کِرپا کیِجےَ ॥
دھۄُرِ سنّتن کی نانک دیِجےَ ॥4॥ 17 ॥ 86 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
تۄُنّ میرا سکھا تۄُنّہی میرا میِتُ ॥
تۄُنّ میرا پ٘ریِتمُ تُم سنّگِ ہیِتُ ॥
تۄُنّ میری پتِ تۄُہےَ میرا گہݨا ॥
تُجھ بِنُ نِمکھُ ن جائی رہݨا ॥1॥
تۄُنّ میرے لالن تۄُنّ میرے پ٘ران ॥
تۄُنّ میرے صاحِب تۄُنّ میرے خان ॥1॥ رہاءُ ॥
جِءُ تُم راکھہُ تِو ہی رہنا ॥
جۄ تُم کہہُ سۄئی مۄہِ کرنا ॥
جہ پیکھءُ تہا تُم بسنا ॥
نِربھءُ نامُ جپءُ تیرا رسنا ॥2॥
تۄُنّ میری نو نِدھِ تۄُنّ بھنّڈارُ ॥
رنّگ رسا تۄُنّ منہِ ادھارُ ॥
تۄُنّ میری سۄبھا تُم سنّگِ رچیِیا ॥
تۄُنّ میری اۄٹ تۄُنّ ہےَ میرا تکیِیا ॥3॥
من تن انّترِ تُہی دھِیائِیا ॥
مرمُ تُمارا گُر تے پائِیا ॥
ستِگُر تے د٘رِڑِیا اِکُ ایکےَ ॥
نانک داس ہرِ ہرِ ہرِ ٹیکےَ ॥4॥ 18 ॥ 87 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
اِس مقدس کے اندر نام کا لامحدود دولت ہے ۔ اس کے اندر ، عظیم بینکر-خدا کے رہنے کے لئے کہا جاتا ہے. وہ کون کون ہے جو نام کے تاجر ہیں جو اس بینکر-دیوتا کے ساتھ اعتماد رکھتا ہے ؟ | | 1 | | نایاب زیور کی طرح ، قیمتی نام کے حقیقی تاجر ہیں ، جنہوں نے نام کے مہکنا امرت کو اپنے رزق کے طور پر بنایا ہے. || 1 | | توقف | | میرے جسم اور دماغ کو ہتھیار ڈالنے دینے ، میں اُس کی خدمت کروں گا ۔ (میں اس سے دریافت کروں گا) ، جس کے ذریعہ خدا خوش ہے. اپنے اور میری دوگانگی کے تصورات کو شیڈنگ میں اس کو عاجزی سے قبول کروں گا ۔ وہ کون ہے جو میرے نام کا دولت حاصل کرنے میں مدد کر سکتا ہے ؟ | | 2 | کس طرح ایک خدا کی موجودگی حاصل کر سکتے ہیں ؟ وہ راستہ کیا ہے جس کی طرف سے ایک خدا کی طرف سے قبول کیا جاتا ہے ؟ اے خُدا ، آپ سب سے عظیم بینکر ہیں ، جو کہ لاکھوں ٹریڈرز ہیں ۔ نام کا محسن کون ہے ؟ کون مجھے اس کے پاس لے سکتا ہے ؟ | | 3 | | مسلسل تلاش ، میں نے اپنے دل میں خدا کو احساس کیا ہے. گرو نے مجھے انمول زیور جیسے نام کا احساس بنا دیا ہے. جب بھی خدا اپنے ساتھ ایک شخص کو یکجا کرتا ہے ، اس کی رحمت کو ظاہر کرتا ہے ، یہ گرو کی نعمت کے ذریعے ہوا ہے ، نانک کہتے ہیں. رات اور دن ، گرو کا پیروکار خدا کی محبت میں حواریوں رہتا ہے. وہ جانتا ہے کہ خُدا ہمیشہ اُس کے ساتھ ہے ۔ ایسے افراد خدا کے نام کو زندگی کی راہ میں روزانہ کی ضرورت کے طور پر بناتے ہیں ۔ خدا کا احساس وہ ہمیشہ ترپت رہتا ہے. || 1 | | حواریوں خُدا کی محبت کے ساتھ ، اُن کے دماغ اور جسم رہے ہیں ، کامل گرو کی پناہ گاہ کی تلاش وہ لوگ جو | | 1 | | توقف | | خدا کا نرمل نام ان کی روح کی حمایت ہے. وہ صرف ہر جگہ وسعت خدا کو دیکھتے ہیں اور ہمیشہ اس کے حکم کی پیروی کرتے ہیں. وہ ہمیشہ خدا سے عقیدت مند رہتے ہیں اور صرف نام پر مراقبہ کرتے ہیں. وہ ایک دوسرے کے سوا کوئی اور عبادت کم خدا. || 2 | | وہ خوشی اور درد کے اثرات سے آزاد کر رہے ہیں. وہ ہمیشہ دنیاوی دولت سے الگ رہتے ہیں ۔ خُدا کے باخبر رہے اور زندہ بواجبی ۔ وہ سب میں رہتے ہیں ، اور ابھی تک الگ اور علیحدہ ہیں. وہ ہمیشہ سے عظیم خدا کے باخبر رہے ہیں. || 3 | | میں مقدسوں کی کیا عظمت بیان کر سکتا ہوں ؟ ان کی روحانی حکمت اتاہ ہے ۔ میں ان کی مالیت کا اندازہ نہیں کر سکتا. اے عظیم خُدا ، براہِ کرم میری پر رحم کر ، اور مقدسوں کی فروتن خدمت کے ساتھ برکت دے ، نانک کی دعائیں ۔ اے خُدا ، تُو واحد میرا ساتھی اور میرا سب سے اچھا دوست ہے ۔ تُو میرا پیارا اور تیرے ساتھ ہے جو میں پیار میں ہوں ۔ تُو میرا اعزاز ہے ۔ تم میری سجاوٹ ہو. آپ کے بغیر ، میں زندہ نہیں رہ سکتا ، یہاں تک کہ ایک فوری طور پر. || 1 | | اے خُدا ، تُو میرا پیارا ہے اور تُو میری زندگی کا دم ہے ۔ تُو میرا آقا ہے ، تُو میرا سردار ہے ۔ || 1 | | توقف | | اے خدا ، میں خوشی سے اپنی صورتحال میں زندگی بسر کرتا ہوں ۔ جو کچھ تم کہتے ہو وہ وہی ہے جو میں کرتا ہوں ۔ جہاں بھی میں دیکھتا ہوں ، وہاں میں آپ کو رہائش گاہ دیکھتا ہوں ۔ میں اپنے خوف سے متعلق کا نام اپنی زبان کے ساتھ پڑھنا رکھتا ہوں ۔ || 2 | | اے خُدا ، میرے لیے میری دولت اور خزانہ ہے ۔ میرے لیے تُو تمام دنیاوی خوشیوں اور میرے دماغ کی مدد ہے ۔ تُو میرا جلال ہے اور میں تیری طرف باخبر رہتا ہوں ۔ تُو میری پناہ گاہ ہے اور تُو میری مدد ہے ۔ || 3 | | میرے ذہن اور جسم کے اندر گہری میں پیار کرتا ہوں آپ پر مراقبہ. میں نے گرو سے اپنا راز محسوس کیا ہے. ایک جس نے گرو سے خدا کا نام موصول کیا ہے اور اس نے اپنے دل میں اسے نانک کیا ہے ، اے ‘ ، اس کے ساتھ ساتھ خدا کے نام کی حمایت کرتا ہے.

بِیاپت ہرکھ سۄگ بِستھار ॥
بِیاپت سُرگ نرک اوتار ॥
بِیاپت دھن نِردھن پیکھِ سۄبھا ॥
مۄُلُ بِیادھی بِیاپسِ لۄبھا ॥1॥
مائِیا بِیاپت بہُ پرکاری ॥
سنّت جیِوہِ پ٘ربھ اۄٹ تُماری ॥1॥ رہاءُ ॥
بِیاپت اہنّبُدھِ کا ماتا ॥
بِیاپت پُت٘ر کلت٘ر سنّگِ راتا ॥
بِیاپت ہستِ گھۄڑے ارُ بستا ॥
بِیاپت رۄُپ جۄبن مد مستا ॥2॥
بِیاپت بھۄُمِ رنّک ارُ رنّگا ॥
بِیاپت گیِت ناد سُݨِ سنّگا ॥
بِیاپت سیج محل سیِگار ॥
پنّچ دۄُت بِیاپت انّدھِیار ॥3॥
بِیاپت کرم کرےَ ہءُ پھاسا ॥
بِیاپتِ گِرست بِیاپت اُداسا ॥
آچار بِئُہار بِیاپت اِہ زاتِ ॥
سبھ کِچھُ بِیاپت
بِنُ ہرِ رنّگ رات ॥4॥
سنّتن کے بنّدھن کاٹے ہرِ راءِ ॥
تا کءُ کہا بِیاپےَ ماءِ ۔ ॥
کہُ نانک جِنِ دھۄُرِ سنّت پائی ॥
تا کےَ نِکٹِ ن آوےَ مائی ॥5॥ 19 ॥ 88 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
نیَنہُ نیِد پر د٘رِسٹِ وِکار ॥
س٘روݨ سۄۓ سُݨِ نِنّد ویِچار ॥
رسنا سۄئی لۄبھِ میِٹھےَ سادِ ॥
منُ سۄئِیا مائِیا بِسمادِ ॥1॥
اِسُ گ٘رِہ مہِ کۄئی جاگتُ رہےَ ॥
سابتُ وستُ اۄہُ اپنی لہےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
سگل سہیلی اپنےَ رس ماتی ॥
گ٘رِہ اپُنے کی خبرِ ن جاتی ॥
مُسنہار پنّچ بٹوارے ॥
سۄُنے نگرِ پرے ٹھگہارے ॥2॥
اُن تے راکھےَ باپُ ن مائی ॥
اُن تے راکھےَ میِتُ ن بھائی ॥
دربِ سِیاݨپ نا اۄءِ رہتے ॥
سادھسنّگِ اۄءِ دُسٹ وسِ ہۄتے ॥3॥
کرِ کِرپا مۄہِ سارِنّگپاݨِ ۔ ॥
سنّتن دھۄُرِ سرب نِدھان ॥
سابتُ پۄُنّجی ستِگُر سنّگِ ॥
نانک جاگےَ پارب٘رہم کےَ رنّگِ ॥4॥
سۄ جاگےَ جِسُ پ٘ربھُ کِرپالُ ॥
اِہ پۄُنّجی سابتُ دھنُ مالُ ॥1॥ رہاءُ دۄُجا ॥ 20 ॥ 89 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
جا کےَ وسِ خان سُلطان ॥
جا کےَ وسِ ہےَ سگل جہان ॥
جا کا کیِیا سبھُ کِچھُ ہۄءِ ॥
تِس تے باہرِ ناہی کۄءِ ॥1॥
کہُ بیننّتی اپُنے ستِگُر پاہِ ॥
کاج تُمارے دےءِ نِباہِ ॥1॥ رہاءُ ॥
سبھ تے اۄُچ جا کا دربارُ ॥
سگل بھگت جا کا نامُ ادھارُ ॥
سربُ بِیاپِت پۄُرن دھنی ॥
جا کی سۄبھا گھٹِ گھٹِ بنی ॥2॥
جِسُ سِمرت دُکھ ڈیرا ڈھہےَ ॥
جِسُ سِمرت جمُ کِچھۄُ ن کہےَ ॥
جِسُ سِمرت ہۄت سۄُکے ہرے ॥
مایا نے کچھ درد اور دوسروں کے ذریعے خوشی کی نمائش کے ذریعے پہنچتی کیا ۔ یہ جنت اور جہنم کے حالات میں رہنے کے ذریعے لوگوں کو عذاب ہے. یہ امیر ، غریب اور وہ لوگ جو خود کو عزت پاتے ہیں پہنچتی. اس مصیبت کی بنیادی وجہ ایک شکل یا دوسرے میں لالچ ہے. || 1 | | مایا بہت سے طریقوں سے لوگوں کو عذاب ہے ۔ اے خُدا ، مقدسین آپ کے تحفظ کے تحت نعمتوں سے لطف اندوز ہوتے ہیں ۔ || 1 | | توقف | | مایا ایک عذاب ہے جو خود کو متوالے ہے ۔ یہ بچوں اور شریک حیات کے لئے محبت کے ساتھ حواریوں ہے جو ایک پہنچتی. مایا اس طرح ہاتھیوں ، گھوڑوں اور خوبصورت کپڑے جیسے مال کے عذاب. یہ خوبصورتی اور نوجوانوں کے ساتھ ایک متوالے عذاب ہے. || 2 | | یہ عذاب جاگیرداروں ، پاوپارس اور مالدار میٹیل ہیں ۔ یہ ان لوگوں کو پہنچتی ہے جو جماعتوں میں گانے اور موسیقی کو سن رہے ہیں. یہ خوبصورت بستر ، محلات اور سجاوٹ کے ذریعے لوگوں کو عذاب ہے. بعض اوقات یہ پانچ برے جذبات کی تاریکی کے ذریعے ان کے اثرات. || 3 | | یہ بھی ایک ہے جو بواجبی اعمال عذاب لیکن انا میں الجھا ہے. مایا نے گھر کے ساتھ ساتھ عذاب کو دوبارہ استعمال کیا ۔ یہ کردار ، طرز زندگی اور سماجی حیثیت میں فخر کے ذریعے لوگوں کو عذاب ہے. مایا پہنچتی جب خدا کے لئے محبت کی کمی ہے | | 4 | | خود مختار خدا سنتوں کے لئے مایا کے بانڈز دور کاٹتا ہے. لہذا ، مایا انہیں بالکل عذاب نہیں دے سکتی ۔ نانک کا کہنا ہے کہ ایک شخص جو اس گرو کی تعلیمات پر عاجزی رکھتا ہے ، مایا اس شخص کے قریب نہیں کھینچ سکتیآنکھوں کو دوسروں پر ان کی بری نظر سے کاسٹنگ میں بے ہوش ہیں. کانوں ننداتمک کہانیوں کو سننے میں بے ہوش ہیں. یہ زبان میٹھی ذائقوں کی خواہشات میں بے ہوش ہے ۔ یہ من مایا (یعنی دنیاوی دولت) سے مرعوب ہے ۔ || 1 | | مایا (دنیاوی توجہ) کے اونسلاوگوںس سے صرف ایک نادر ہی آگاہ ہے ۔ اور اپنی دولت کی زندگی کو برقرار رکھتا ہے .جسم کے تمام حسی اعضاء ان کی اپنی خوشیوں سے لطف اندوز کرنے میں مصروف ہیں. وہ کے خلاف اپنے جسم کی حفاظت کرنے کی پرواہ نہیں کرتے. پانچ لٹیروں اور ڈاکوؤں (ہوس ، غصہ ، لالچ ، لگاؤ اور انا) ، غیر محفوظ گھر (جسم) پر اترتے ہیں ۔ || 2 | | نہ ہمارے باپ اور نہ ہی ہماری ماں ہمیں ان ڈاکوؤں سے بچا سکتی ہے ۔ کوئی بھی ہمیں اُن سے بچا سکتا ہے ۔ وہ دولت یا چالاکی کی طرف سے کنٹرول نہیں کیا جا سکتا. یہ صرف پاک کی کمپنی کے ذریعے ہے کہ یہ ھلنایک کنٹرول کیا جا سکتا ہے. اے خدا ، مجھ پر رحم کرے ، اور مقدسین کی شائستہ خدمت کے ساتھ مجھے برکت دے جو کہ حقیقی خزانہ ہے ۔ انسانی زندگی کی حقیقی دولت حقیقی گرو کی کمپنی میں برقرار رہتی ہے ۔ خدا کی محبت کے ساتھ حواریوں کیا جا رہا ہے ، نانک ان سے آگاہ رہتا ہے. || 4 | | جس کو خدا اپنی رحمت سے ظاہر کرتا ہے وہ ان سے واقف ہے اور روحانی زندگی کی دولت کو محفوظ رکھتا ہے ۔جو تمام بادشاہوں اور سرداروں کو کنٹرول کرتا ہے ۔ جس نے پوری کائنات کو حکم دیا ہے ، جس کی طرف سے سب کچھ ہوتا ہے ، اس کے حکم کے بغیر کچھ بھی نہیں ہوتا. || 1 | | اپنے سچے گرو کو اپنی دعاؤں کی پیشکش کرو. وہ آپ کے کاموں کو پورا کرے گا. || 1 | | توقف | | جس کی عدالت سب سے بلند ہے جس کا نام تمام عقیدت مندوں کی حمایت ہے ، یہ کامل ماسٹر ہر جگہ وسعت ہے ۔ جس کا جلال ہر ایک اور ہر دل میں ظاہر ہوتا ہے | | 2 | | اس پر مراقبہ سے جو تمام گھریلوالجھنوں ختم ہو گئے ہیں ۔ اس پر مراقبہ سے جس پر موت کا خوف دماغ کو تکلیف نہیں دیتا اور جس پر ہے ۔

جِس سِمرت ڈۄُبت پاہن ترے ॥3॥
سنّت سبھا کءُ سدا جیَکارُ ॥
ہرِ ہرِ نامُ جن پ٘ران ادھارُ ॥
کہُ نانک میری سُݨی عرداسِ ॥
سنّت پ٘رسادِ مۄ کءُ نام نِواس ॥4॥ 21 ॥ 90 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
ستِگُر درسنِ اگنِ نِواری ॥
ستِگُر بھیٹت ہئُمےَ ماری ॥
ستِگُر سنّگِ ناہی منُ ڈۄلےَ ॥
انّم٘رِت باݨی گُرمُکھِ بۄلےَ ॥1॥
سبھُ جگُ ساچا جا سچ مہِ راتے ॥
سیِتل ساتِ گُر تے پ٘ربھ جاتے ॥1॥ رہاءُ ॥
سنّت پ٘رسادِ جپےَ ہرِ ناءُ ॥
سنّت پ٘رسادِ ہرِ کیِرتنُ گاءُ ॥
سنّت پ٘رسادِ سگل دُکھ مِٹے ॥
سنّت پ٘رسادِ بنّدھن تے چھُٹے ॥2॥
سنّت ک٘رِپا تے مِٹے مۄہ بھرم ॥
سادھ ریݨ مجن سبھِ دھرم ॥
سادھ ک٘رِپال دئِیال گۄوِنّدُ ॥
سادھا مہِ اِہ ہمری جِنّدُ ॥3॥
کِرپا نِدھِ کِرپال دھِیاوءُ ॥
سادھسنّگِ تا بیَٹھݨُ پاوءُ ॥
مۄہِ نِرگُݨ کءُ پ٘ربھِ کیِنی دئِیا ॥
سادھسنّگِ نانک نامُ لئِیا ॥4॥ 22 ॥ 91 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
سادھسنّگِ جپِئۄ بھگونّتُ ॥
کیول نامُ دیِئۄ گُرِ منّتُ ॥
تجِ ابھِمان بھۓ نِرویَر ॥
آٹھ پہر پۄُجہُ گُر پیَر ॥1॥
اب متِ بِنسی دُسٹ بِگانی ॥
جب تے سُݨِیا ہرِ جسُ کانی ॥1॥ رہاءُ ॥
سہج سۄُکھ آننّد نِدھان ॥
راکھنہار رکھِ لےءِ نِدان ॥
دۄُکھ درد بِنسے بھےَ بھرم ॥
آوݨ جاݨ رکھے کرِ کرم ॥2॥
پیکھےَ بۄلےَ سُݨےَ سبھُ آپِ ॥
سدا سنّگِ تا کءُ من جاپِ ॥
سنّت پ٘رسادِ بھئِئۄ پرگاسُ ॥
پۄُرِ رہے ایکےَ گُݨتاسُ ॥3॥
کہت پوِت٘ر سُݨت پُنیِت ॥
گُݨ گۄوِنّد گاوہِ نِت نیِت ॥
کہُ نانک جا کءُ ہۄہُ ک٘رِپال ॥
تِسُ جن کی سبھ پۄُرن گھال ॥4॥ 23 ॥ 92 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
بنّدھن تۄڑِ بۄلاوےَ رامُ ॥
من مہِ لاگےَ ساچُ دھِیانُ ॥
مِٹہِ کلیس سُکھی ہۄءِ رہیِۓَ ॥
ایَسا داتا ستِگُرُ کہیِۓَ ॥1॥
سۄ سُکھداتا جِ نامُ جپاوےَ ॥
کرِ کِرپا تِسُ سنّگِ مِلاوےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
جِسُ ہۄءِ دئِیالُ تِسُ آپِ مِلاوےَ ॥
سرب نِدھان گُرۄُ تے پاوےَ ॥
آپُ تِیاگِ مِٹےَ آوݨ جاݨا ॥
سادھ کےَ سنّگِ پارب٘رہمُ پچھاݨا ॥2॥
جن اۄُپرِ پ٘ربھ بھۓ دئِیال ॥
جس سے بھی پتھر دل کے سمندر کے پار واقع ہے ۔ || 3 | | مقدس جماعت کی طرف جھکا. خدا کا نام عقیدت مندوں کی زندگی کے سانس کی حمایت ہے. نانک کا کہنا ہے کہ ، خدا نے میری دعا سنی ہے ، اور گرو کے فضل کے ذریعے ، میرے دل میں نام بیان کیا ہےآئینہ اور حقیقی گرو کی تعلیمات کے بعد ، دنیاوی خواہشات کی ایک آگ بجھتی ہے ۔ اجلاس اور حقیقی گرو کی تعلیمات کے بعد ، ایک میں انا کو ہلاک کیا. سچے گرو کی کمپنی میں, ذہن ججکنا نہیں کرتا, گرو کے پیروکار خدا کی تعریف کی مہکنا الفاظ یوٹارس. || 1 | | جب من ابدی خُدا کی محبت سے حواریوں ہے تو ساری دُنیا ابدی خُدا کی اوتار کے طور پر آتی ہے ۔ جب خدا گرو کے ذریعے احساس ہوا ہے تو ، ذہن ٹھنڈی اور پرسکون ہو جاتا ہے. || 1 | | توقف | | سنتوں کے فضل سے ، ایک خدا کے نام منتروں. سنتوں کے فضل سے ، ایک خدا کی تعریف گاتی. مقدسوں کے فضل سے تمام تر لوگ مٹ گئے ۔ سنتوں کے فضل سے ، ایک مایا کی غلامی سے جاری کیا جاتا ہے. || 2 | | سنتوں کی رحمت سے ، جذباتی تعلق اور شک ہٹا دیا جاتا ہے. گرو کی تعلیمات کے بعد تمام مذاہب کے اعمال کی میرٹ کا احاطہ ہوتا ہے ۔ جب سینٹ گرو کسی پر مہربان بن جاتا ہے تو خدا بھی رحم کو ظاہر کرتا ہے ۔ میری زندگی سینٹ (گرو) کے لئے وقف ہے. || 3 | | جب میں رحم کے خزانہ پر مراقبہ کرتا ہوں ، قسم کا خدا ، پھر اکیلے ، میں مقدس جماعت سے وابستہ ہونے کا موقع ملتا ہوں ۔ خدا نے میرے بارے میں ایک نانک اور اے ‘ کے بغیر رحم کا اظہار کیا ، میں نے مقدس جماعت میں نام پر مراقبہ وہ لوگ جنہوں نے سینٹ گرو کی کمپنی میں خدا کے نام پر مراقبہ کیا ہے ، ان کے لئے صرف گرو نے نرمل نام کے منتر کو برکت دی ہے. ان کی انا کو شیڈنگ ، وہ کسی کی طرف دشمنی سے آزاد ہو گئے ہیں. ایک دن چوبیس گھنٹے ، گرو کے پاؤں پر عبادت (ہر وقت گرو کی تعلیمات پر عمل کریں). || 1 | | میری برائی اور جاہل معنی مجھے چھوڑ دیا ہے, وقت کے بعد میں نے اپنے اپنے کانوں کے ساتھ خدا کی تعریف سنی ہے. || 1 | | توقف | | خدا ، بدیہی امن اور نعمتوں کا خزانہ ، بالآخر ان کو بچا لیا ہے. ان کے تمام دکھوں, درد, خوف, اور شکوک و شبہات کو تباہ کر دیا گیا ہے. کریمانہ وہ انہیں پیدائش اور موت کے ادوار سے بچاتا ہے | | 2 | | وسعت کی طرف سے وہ خود کو ، بولتا اور سنتا ہے. اے میرے دماغ کو اس پر غور کرنا جو ہمیشہ تمہارے ساتھ ہوتا ہے ۔ سینٹ گرو کے فضل کی طرف سے ، جن کے ذہن میں الہی روشنی ظاہر ہوئی ہے ، اس نے خدا ، وسعت کے خزانہ ، ہر جگہ کی. || 3 | | جو لوگ پڑھتے ہیں اور پاکیزہ ہیں وہ لوگ جو سنتے ہیں اور خدا کی حمد کرتے ہیں ۔ نانک کہتا ہے کہ اے خدا جس پر تم مہربان ہو تو اس کی سب کوشش کامیاب ہو گئی ۔گرو مایا کے ہمارے بانڈز ٹوٹ جاتا ہے اور ہمیں خدا کے نام کو گانا کرنے کی حوصلہ افزائی کرتا ہے. ذہن ابدی خدا کو باخبر ہو جاتا ہے, غم خاتمہ اور امن میں ایک رہتا ہے. سچا گرو اس طرح ایک محسن کہا جاتا ہے. || 1 | | وہ اکیلا سچا گرو ہے جو ہمیں اپنے نام پر مراقبہ کرنے کی ترغیب دے رہا ہے ، اور رحم ہمیں خدا کے ساتھ متحد کرتا ہے ۔ || 1 | | توقف | | خدا اس شخص کو جو اس نے اپنی مہربانی سے ظاہر کرتا ہے کے ساتھ اس کے ساتھ یکجا. پھر وہ نام حاصل, روحانی ترقی کے خزانے, گرو سے. خود اعتمادی اور انا کو شیڈنگ کرکے ، اس کی پیدائش اور موت کے دور کا خاتمہ ہو جاتا ہے ، اور سینٹ گرو کی کمپنی میں ، وہ سپریم خدا کا احساس. || 2 | | جس پر خدا رحیم ہے ۔
جن کی ٹیک ایک گۄپال ॥
ایکا لِو ایکۄ منِ بھاءُ ॥
سرب نِدھان جن کےَ ہرِ ناءُ ॥3॥
پارب٘رہم سِءُ لاگی پ٘ریِتِ ॥
نِرمل کرݨی ساچی ریِتِ ॥
گُرِ پۄُرےَ میٹِیا انّدھِیارا ॥
نانک کا پ٘ربھُ اپر اپارا ॥4॥ 24 ॥ 93 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
جِسُ منِ وسےَ ترےَ جنُ سۄءِ ॥
جا کےَ کرمِ پراپتِ ہۄءِ ॥
دۄُکھُ رۄگُ کچھُ بھءُ ن بِیاپےَ ॥
انّم٘رِت نامُ رِدےَ ہرِ جاپےَ ॥1॥
پارب٘رہم پرمیسُرُ دھِیائیِۓَ ॥
گُر پۄُرے تے اِہ متِ پائیِۓَ ॥1॥ رہاءُ ॥
کرݨ کراونہار دئِیال ॥
جیء جنّت سگلے پ٘رتِپال ॥
اگم اگۄچر سدا بیئنّتا ॥
سِمرِ منا پۄُرے گُر منّتا ॥2॥
جا کی سیوا سرب نِدھانُ ॥
پ٘ربھ کی پۄُجا پائیِۓَ مانُ ॥
جا کی ٹہل ن بِرتھی جاءِ ॥
سدا سدا ہرِ کے گُݨ گاءِ ॥3॥
کرِ کِرپا پ٘ربھ انّترجامی ۔ ॥
سُکھ نِدھان ہرِ الکھ سُیامی ۔ ॥
جیء جنّت تیری سرݨائی ॥
نانک نامُ مِلےَ وڈِیائی ॥4॥ 25 ॥ 94 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
جیء جُگتِ جا کےَ ہےَ ہاتھ ॥
سۄ سِمرہُ اناتھ کۄ ناتھُ ॥
پ٘ربھ چِتِ آۓ سبھُ دُکھُ جاءِ ॥
بھےَ سبھ بِنسہِ ہرِ کےَ ناءِ ॥1॥
بِنُ ہرِ بھءُ کاہے کا مانہِ ۔ ॥
ہرِ بِسرت کاہے سُکھُ جانہِ ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
جِنِ دھارے بہُ دھرݨِ اگاس ॥
جا کی جۄتِ جیء پرگاس ॥
جا کی بخش ن میٹےَ کۄءِ ॥
سِمرِ سِمرِ پ٘ربھُ نِربھءُ ہۄءِ ॥2॥
آٹھ پہر سِمرہُ پ٘ربھ نامُ ॥
انِک تیِرتھ مجنُ اِسنانُ ॥
پارب٘رہم کی سرݨی پاہِ ॥
کۄٹِ کلنّک کھِن مہِ مِٹِ جاہِ ॥3॥
بیمُہتاجُ پۄُرا پاتِشاہُ ॥
پ٘ربھ سیوک ساچا ویساہُ ॥
گُرِ پۄُرےَ راکھے دے ہاتھ ॥
نانک پارب٘رہم سمراتھ ॥4॥ 26 ॥ 95 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
گُر پرسادِ نامِ منُ لاگا ॥
جنم جنم کا سۄئِیا جاگا ॥
انّم٘رِت گُݨ اُچرےَ پ٘ربھ باݨی ॥
پۄُرے گُر کی سُمتِ پراݨی ॥1॥
پ٘ربھ سِمرت کُسل سبھِ پاۓ ॥
گھرِ باہرِ سُکھ سہج سباۓ ॥1॥ رہاءُ ॥
سۄئی پچھاتا جِنہِ اُپائِیا ॥
کرِ کِرپا پ٘ربھِ آپِ مِلائِیا ॥
باہ پکرِ لیِنۄ کرِ اپنا ॥
ہرِ ہرِ کتھا سدا جپُ جپنا ॥2॥
منّت٘رُ تنّت٘رُ ائُکھدھُ پُنہچارُ ॥
خدا اس طرح کے ایک حامی کے لئے صرف حمایت بن جاتا ہے. اس طرح کا ایک باخبر خدا کے پاس جاتا ہے اور اس کا دماغ خدا کے لئے محبت سے بھرا ہوا ہے. اس کے لئے ، خدا کا نام تمام قسم کے خزانے بن جاتا ہے وہ خدا کی محبت سے حواریوں ہے. یہ سب کے اعمال نرمل بن جاتے ہیں اور یہ عمل سچا ہو جاتا ہے ۔ کامل گرو نے اپنے دماغ سے جہالت کی تاریکی کو داسپاللاد ہے ۔ نانک کا خُدا لاثانی اور لامحدود ہے ۔ پانچویں گرو کی طرف سے گاوری گوارایری ، جس کے ذہن میں خدا رہتا ، وہ کی دنیاوی سمندر بھر میں. خدا کے فضل سے ، جب کوئی اسے احساس ہوتا ہے ، تو درد ، بیماری اور خوف اس پر اثر انداز نہیں ہوتا. کیونکہ وہ ہمیشہ اپنے دل میں امرت کی طرح خدا کے نام کو یاد کرتا ہے. ہم ہمیشہ محبت اور عقیدت کے ساتھ تمام وسعت خدا کو یاد رکھنا چاہئے. یہ تفہیم کامل گرو سے حاصل کی جاتی ہے. مہربان خُدا ہی ہے اور اسباب کی وجہ سے ۔ وہ انتہائی رغبت اور تمام مخلوقات اور مخلوقات کو نورٹوراس ہے ۔ وہ ناقابل رسائی ، سمجھ ، ابدی اور لامحدود ہے ۔ اے میرے دماغ کو کامل گرو کی تعلیمات کے وسیلہ سے اس پر غور کرو ۔ || 2 | | محبت عقیدت کے ساتھ اسے یاد, تمام خزانے حاصل کر رہے ہیں. عبادت خدا ، عزت حاصل کی جاتی ہے ۔ ان کی تخلیق کی خدمت کبھی ضائع نہیں ہو گی) ۔ ہمیشہ اور کبھی ، خدا کی شاندار تعریف گاتے ہیں. || 3 | | اے خدا ، ذہنوں کا باطن ، مہربانی سے شفقت عطا فرما ۔ اے ‘ امن آرام اور سمجھ ماسٹر کا خزانہ تمام مخلوقات اور مخلوقات تیرے مقدس کی تلاش کرتے ہیں ۔ اے ‘ نانک (خدا سے دعا کرو) کہ میں تیرے نام سے برکت پاتا جو میرے لیے اعزاز کا باعث ہو ۔ اے میرے دوست ، جس کے ہاتھ میں تمام مخلوق کی زندگی کا راستہ ہے. یاد رکھیں کہ بےخاوند کے مالک کی محبت عقیدت کے ساتھ. محبت عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد کرتے ہوئے ، تمام پر پوری طرح سے جانا جاتا ہے. سب خوف خُدا کے نام سے داسپاللاد ہیں ۔ آپ خدا کے سوا کسی اور سے کیوں ڈرتے ہیں ؟ خدا کو بھول کر ، آپ کس قسم کی امن حاصل کرتے ہیں ؟ انہوں نے کہا کہ بہت سے دہاتوں اور آسمان کی حمایت کی ہے. جس کا نور ہماری روح روشن ہے ۔ جس کی برکتیں کوئی بھی منسوخ نہیں کرسکتے ۔ جو کوئی ہمیشہ خدا کو یاد کرتا ہے وہ دنیاوی خوف سے بے خوف ہو جاتا ہے ۔ (اے میرے دوست), ہر وقت, محبت کی عقیدت کے ساتھ خدا کے نام یاد رکھنا. محبت عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد کرنا بہت سے مقدس مقامات پر غسل کی طرح ہے. آپ کو سپریم خدا کے مقدس تلاش تو. پھر لاکھوں کو اس طرح کے گناہوں کو فوری طور پر مٹا دیا جائے گا ۔ || 3 | | کامل بادشاہ (خدا) خود کفیل ہے ۔ خُدا کے خادم نے اُس میں سچا ایمان ہے ۔ خدا کامل گرو کے ذریعے اپنے عقیدت مندوں کی حفاظت کرتا ہے. اے نانک ، سپریم خدا تمام طاقتور ہے. گرو کے فضل سے ، میرا من نام ، خُدا کے نام سے منسلک ہے ۔ سو (مایا کی محبت میں ڈوب جاتا ہے) بہت سے اوتاروں کے لئے ، اب یہ بیدار ہے (سچی حکمت کے ساتھ روشن خیال) ۔ میں مہکنا بنی خدا کی شان کی تعریف کرتا ہوں ۔ میرا دماغ کامل گرو کی شاندار حکمت کو محسوس کیا ہے. محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد کرتے ہوئے ، میں نے کل امن پایا ہے. اب میرے ذہن اور باہر دونوں کے اندر امن اور ہم دونوں کا بھی ایک ہے ۔ میں نے مجھے پیدا کیا ہے جو ایک احساس ہوا ہے. اُس کی رحمت کو ظاہر کرتے ، خُدا نے مجھے اپنے ساتھ ضم کیا ہے ۔ مجھے بازو کی طرف سے لے کر اپنا تحفظ عطا کیا ، اُس نے مجھے اپنا بنایا ہے ۔ سو اب میں خدا کی حمد کو مسلسل پڑھتا ہوں ۔ میں نے محسوس کیا ہے کہ تمام منتر ، تنتروں ، تمام علاج ادویات اور کفارہ کے اعمال خدا کے نام میں موجود ہیں ،

ہرِ ہرِ نامُ جیء پ٘ران ادھارُ ॥
ساچا دھنُ پائِئۄ ہرِ رنّگِ ॥
دُترُ ترے سادھ کےَ سنّگِ ॥3॥
سُکھِ بیَسہُ سنّت سجن پروارُ ॥
ہرِ دھنُ کھٹِئۄ جا کا ناہِ شُمارُ ॥
جِسہِ پراپتِ تِسُ گُرُ دےءِ ॥
نانک بِرتھا کۄءِ ن ہےءِ ॥4॥ 27 ॥ 96 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
ہست پُنیِت ہۄہِ تتکال ॥
بِنسِ جاہِ مائِیا زنّجال ॥
رسنا رمہُ رام گُݨ نیِت ॥
سُکھُ پاوہُ میرے بھائی میِت ۔ ॥1॥
لِکھُ لیکھݨِ کاگدِ مسواݨی ॥
رام نام ہرِ انّم٘رِت باݨی ॥1॥ رہاءُ ॥
اِہ کارجِ تیرے جاہِ بِکار ॥
سِمرت رام ناہی جم مار ॥
دھرم راءِ کے دۄُت ن جۄہےَ ॥
مائِیا مگن ن کچھۄُۓَ مۄہےَ ॥2॥
اُدھرہِ آپِ ترےَ سنّسارُ ॥
رام نام جپِ ایکنّکارُ ॥
آپِ کماءُ اورا اُپدیس ॥
رام نام ہِردےَ پرویس ॥3॥
جا کےَ ماتھےَ ایہُ نِدھانُ ॥
سۄئی پُرکھُ جپےَ بھگوانُ ॥
آٹھ پہر ہرِ ہرِ گُݨ گاءُ ॥
کہُ نانک ہءُ تِسُ بلِ جاءُ ॥4॥ 28 ॥ 97 ॥
راگُ گئُڑی گُیاریری محلا 5 چئُپدے دُپدے
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
جۄ پرائِئۄ سۄئی اپنا ॥
جۄ تجِ چھۄڈن
تِسُ سِءُ منُ رچنا ॥1॥
کہہُ گُسائی مِلیِۓَ کیہ ۔ ॥
جۄ بِبرجت تِس سِءُ نیہ ॥1॥ رہاءُ ॥
جھۄُٹھُ بات سا سچُ کرِ جاتی ॥
ستِ ہۄونُ منِ لگےَ ن راتی ॥2॥
باوےَ مارگُ ٹیڈھا چلنا ॥
سیِدھا چھۄڈِ اپۄُٹھا بُننا ॥3॥
دُہا سِرِیا کا خصمُ پ٘ربھُ سۄئی ॥
جِسُ میلے نانک سۄ مُکتا ہۄئی ॥4॥ 29 ॥ 98 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
کلِجُگ مہِ مِلِ آۓ سنّجۄگ ॥
جِچرُ آگِیا تِچرُ بھۄگہِ بھۄگ ॥1॥
جلےَ ن پائیِۓَ رام سنیہی ॥
کِرتِ سنّجۄگِ ستی اُٹھِ ہۄئی ॥1॥ رہاءُ ॥
دیکھا دیکھی منہٹھِ جلِ جائیِۓَ ॥
پ٘رِء سنّگُ ن پاوےَ بہُ جۄنِ بھوائیِۓَ ॥2॥
سیِل سنّجمِ پ٘رِء آگِیا مانےَ ॥
تِسُ ناری کءُ دُکھُ ن جمانےَ ॥3॥
کہُ نانک جِنِ پ٘رِءُ پرمیسرُ کرِ جانِیا ॥
دھنّنُ ستی درگہ پروانِیا ॥4॥ 30 ॥ 99 ॥
گئُڑی گُیاریری محلا 5॥
ہم دھنونّت بھاگٹھ سچ ناءِ ॥
ہرِ گُݨ گاوہ سہجِ سُبھاءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
اب نام میری زندگی کی سانس کا ماینستی بن گیا ہے. خدا کی محبت کے ساتھ حواریوں کیا جا رہا ہے ، میں نے نام کی حقیقی دولت حاصل کی ہے. میں نے مقدس جماعت میں شامل ہونے کی طرف سے غدار عالمی سمندر سے تجاوز کر لیا ہے سنتوں (مقدس لوگوں کے خاندان) آپ سب کو روحانی نعمتوں میں رہتے ہیں ، اور نام کی دولت کو حاصل کر سکتے ہیں ، جس کی مالیت کا اندازہ سے باہر ہے. وہ اکیلا اسے حاصل ہے جس کے لئے گرو نے اسے عطا کیا ہے ۔ اے نانک ، کوئی بھی خالی ہاتھ نہ چلے گا ۔ خدا کی تعریف کرتے ہوئے ، آپ کے ہاتھ کو فوری طور پر پاک کیا جائے گا ، اور مایا کی دنیاوی جھگڑوں داسپاللاد ہیں. ہر روز خُدا کے جلال کی حمد کو گانا رکھیں ، اور آپ کو رُوحانی خوشی ملے گی ، اے میرے بھائی ، میرے دوست ۔ اے میرے بھائی ، عقل کے طور پر ذہانت کے ساتھ ، انکپوٹ کے طور پر ذہن میں ، آپ کے اعمال کے کاغذ پر خدا کے بارے میں لکھنے. مہکنا الہٰی الفاظ کے بارے میں لکھیں ۔ اس عمل سے آپ ک داسپاللاد ہوگا ۔ خدا کو یاد کرکے ، آپ موت کے بھوت کے ہاتھوں میں مبتلا نہیں ہوں گے. دھرم کے راستباز منصف کی کوریئرز آپ کو چھو نہیں سکے گی کیونکہ دنیاوی منسلکے (مایا) آپ کو بالکل نہیں دے گا ۔ آپ کو چھڑایا جائے گا ، اور آپ کے ذریعہ ، پوری دنیا کو بچا لیا جائے گا ، اگر آپ خدا ، خالق ، فراہم کرنے والے اور کائنات کے مخرب کو یاد کرتے ہیں. آپ اپنے آپ کو نام کا دولت حاصل کرنا چاہئے اور دوسروں کو ایسا کرنے کے لئے مشورہ دینا چاہئے. اپنے دل میں خُدا کے نام کو ممتاز کریں ۔ اس شخص جس کی قسمت میں نام کا خزانہ تو پہلے سے مقرر ہے ، صرف اس شخص ، محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد کرتا ہے. اس شخص کے لئے ، جو تمام اوقات میں خدا کی تعریف کرتا ہے ، نانک کہتے ہیں ، میں نے اپنی زندگی کو اس سے وقف کیا. ایک ابدی خدا ۔ سچے گرو کے فضل سے احساس ہوا: دنیاوی دولت اور مال جو دوسروں سے تعلق رکھتا ہے ، ہم اس کا دعویٰ کرتے ہیں ، ہمارا من ان چیزوں سے منسلک ہے جو ہم اس دنیا سے روانہ ہوتے ہیں ۔ مجھے بتاو کہ ہم کس طرح کائنات کے مالک کو پورا کر سکتے ہیں ؟ جب ہم کسی چیز سے پیار کرتے ہیں جو حرام ہے ۔ جو بھی جھوٹی اور مختصر رہتا ہے (اس طرح ہمارا جسم) ، ہم یہ سچ سمجھتے ہیں ، لیکن جو کچھ بھی سچ ہے (اس طرح ہماری موت) ، ہمارے ذہن کو بالکل قائل نہیں کرتا. ہم اپنی زندگی میں جھوٹ کی ٹیڑھا راہ پر عمل کرتے ہیں ۔ سچا راستہ چھوڑ کر ، ہم اپنے آپ کو زندگی کا غلط نمونہ بنے ہوئے ہیں ۔(یعنی انسانوں کو بھی بے بس ہیں) کیونکہ خدا ہی زندگی کے اچھے اور برے واقعات کا مالک ہے ۔ اے نانک ، جسے وہ اپنے ساتھ یکجا کرتا ہے ، وہ غلط راستے سے محفوظ ہے ۔ کل یوگ کی تاریک عمر میں, وہ (شوہر اور بیوی) قسمت کے ذریعے ایک ساتھ آتے ہیں. وہ جب تک خدا اتنی اجازت دیتا ہے کے طور پر ایک دوسرے کی کمپنی سے لطف اندوز. اپنے مردار شوہر کے چتا پر خود کو جلانے سے ایک عورت اپنے محبوب شوہر کے ساتھ متحد نہیں ہو سکتی ۔ وہ ستی ہو جاتا ہے (خواتین جو اپنے شوہر کے چتا پر زندہ جلا دیتی ہے) اس کے مردہ شوہر کے ساتھ متحد ہونے کی امید کے ساتھ. دوسروں کو مشابہت ، اور اس کے ضد دماغ کے بعد ، وہ خود کو جلا دیتا ہے. لیکن ، ایسا کرنے سے وہ اس کے مردہ محبوب کی کمپنی حاصل نہیں ہے ، اس کے بجائے وہ پیدائش اور موت کے بے شمار ادوار کے ذریع. خواتین ، جو خود کو کنٹرول اور نیک عمل رکھتا ہے ، اور اس کے محبوب (شوہر) کو پلٹ ہے. ایسی عورت موت کے شیاطین کے ہاتھوں میں مبتلا نہیں ہوتی ۔ l نانک کہتے ہیں کہ, خواتین کو صرف اس کے شوہر سے محبت کرتا ہے اور خدا کی طرح اسے سمجھتا ہے کہ, خواتین بابرکت ستی ہے اور وہ خدا کی عدالت میں اعزاز کے ساتھ حاصل کی ہے. میں اپنے آپ کو حقیقی نام کے اس خزانہ کے ساتھ امیر اور خوش قسمت ہوں. میں نے خدا کی شاندار تعریف ، قدرتی ، بدیہی آسانی کے ساتھ گانا. || 1 | | توقف | |

پیِئۄُ دادے کا کھۄلِ ڈِٹھا خزانا ॥
تا میرےَ منِ بھئِیا نِدھانا ॥1॥
رتن لال جا کا کچھۄُ ن مۄلُ ॥
بھرے بھنّڈار اکھۄُٹ اتۄل ॥2॥
کھاوہِ خرچہِ رلِ مِلِ بھائی ॥
تۄٹِ ن آوےَ ودھدۄ جائی ॥3॥
کہُ نانک جِسُ مستکِ لیکھُ لِکھاءِ ॥
سُ ایتُ خزانےَ لئِیا رلاءِ ॥4॥ 31 ॥ 100 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ڈرِ ڈرِ مرتے جب جانیِۓَ دۄُرِ ॥
ڈرُ چۄُکا دیکھِیا بھرپۄُرِ ॥1॥
ستِگُر اپُنے کءُ بلِہارےَ ॥
چھۄڈِ ن جائی سرپر تارےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
دۄُکھُ رۄگُ سۄگُ بِسرےَ جب نامُ ॥
سدا اننّدُ جا ہرِ گُݨ گامُ ॥2॥
بُرا بھلا کۄئی ن کہیِجےَ ॥
چھۄڈِ مانُ ہرِ چرن گہیِجےَ ॥3॥
کہُ نانک گُر منّت٘رُ چِتارِ ॥
سُکھُ پاوہِ ساچےَ دربارِ ॥4॥ 32 ॥ 101 ॥
گئُڑی محلا 5॥
جا کا میِتُ ساجنُ ہےَ سمیِیا ॥
تِسُ جن کءُ
کہُ کا کی کمیِیا ۔ ॥1॥
جا کی پ٘ریِتِ گۄبِنّد سِءُ لاگی ॥
دۄُکھُ دردُ بھ٘رمُ تا کا بھاگی ॥1॥ رہاءُ ॥
جا کءُ رسُ ہرِ رسُ ہےَ آئِئۄ ॥
سۄ ان رس ناہی لپٹائِئۄ ॥2॥
جا کا کہِیا درگہ چلےَ ॥
سۄ کِس کءُ
ندرِ لےَ آوےَ تلےَ ۔ ॥3॥
جا کا سبھُ کِچھُ تا کا ہۄءِ ॥
نانک تا کءُ سدا سُکھُ ہۄءِ ॥4॥ 33 ॥ 102 ॥
گئُڑی محلا 5॥
جا کےَ دُکھُ سُکھُ سم کرِ جاپےَ ॥
تا کءُ کاڑا کہا بِیاپےَ ۔ ॥1॥
سہج اننّد ہرِ سادھۄُ ماہِ ॥
آگِیاکاری ہرِ ہرِ راءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
جا کےَ اچِنّتُ وسےَ منِ آءِ ॥
تا کءُ چِنّتا کتہۄُنّ ناہِ ॥2॥
جا کےَ بِنسِئۄ من تے بھرما ॥
تا کےَ کچھۄُ ناہی ڈرُ جما ॥3॥
جا کےَ ہِردےَ دیِئۄ گُرِ ناما ॥
کہُ نانک تا کےَ سگل نِدھانا ॥4॥ 34 ॥ 103 ॥
گئُڑی محلا 5॥
اگم رۄُپ کا من مہِ تھانا ॥
گُر پ٘رسادِ کِنےَ وِرلےَ جانا ॥1॥
سہج کتھا کے انّم٘رِت کُنّٹا ॥
جِسہِ پراپتِ تِسُ لےَ بھُنّچا ॥1॥ رہاءُ ॥
انہت باݨی تھانُ نِرالا ॥
تا کی دھُنِ مۄہے گۄپالا ॥2॥
تہ سہج اکھارے انیک اننّتا ॥
پارب٘رہم کے سنّگی سنّتا ॥3॥
ہرکھ اننّتُ سۄگ نہی بیِیا ॥
سۄ گھرُ گُرِ نانک کءُ دیِیا ॥4॥ 35 ॥ 104 ॥
گئُڑی م: 5 ॥
کون رۄُپُ تیرا آرادھءُ ॥
کون جۄگ کائِیا لے سادھءُ ॥1॥
جب میں نے اپنے آباؤ اجداد کے خزانہ (الہٰی الفاظ) کو کھولا اور دیکھا تو میرے ذہن نے محسوس کیا کہ یہ روحانی نعمتوں کا خزانہ حاصل کیا تھا ۔ الہٰی الفاظ کے یہ خزانوں لازوال اور لاتعداد ہیں جو کہ خُدا کی حمد سے بھرا ہوا ہے جو کہ جواہر اور یاقوت جیسی انمول ہیں ۔ اے بھائیو ، جب ہم مقدس جماعت میں اکٹھے ہوتے ہیں ، تو اس خزانہ کو سمجھ لیں اور اس کا اشتراک کریں ، الہٰی الفاظ کا یہ خزانہ کم نہیں ہوتا ، بلکہ یہ ضرب برقرار رکھتا ہے ۔ نانک کا کہنا ہے کہ ، جس کی تقدیر میں یہ الہی نعمت لکھی گئی ہے ، جب تک کہ خُدا دور ہے ، ہم دنیاوی طور پر دنیا اور گھریلوالجھنوں کے خوف کی وجہ سے رُوحانی موت کے ذریعے جانا جاری رکھتے ہیں ۔ تاہم, جب ہم نے محسوس کیا کہ وہ ہر جگہ وسعت ہے, پھر تمام خوف غائب ہو گیا. میں اپنے آپ کو اپنے سچے گرو کی طرف وقف کرتا ہوں ۔ خُدا نے ہمیں کبھی بھی صفائی نہیں کیا ، وہ یقینی طور پر ہولناک دنیا کے سمندر میں ہمیں گھاٹ لگا جاتا ہے ۔ درد ، بیماری اور غم اس وقت آتے ہیں جب کوئی نام تاخیر ہے ۔ ابدی نعمت تب آتی ہے جب کوئی خُدا کی شاندار حمد کے ساتھ گاتی گا ۔ || 2 | | ہمیں کسی کو بھی بہتان یا جھوٹا تعریف نہیں کرنی چاہیے ۔ ہماری انا کو شیڈنگ کرو ہمیں اپنے دل میں خدا کا مزار چاہئے. نانک کہتے ہیں کہ ، گرو کی تعلیمات کو ذہن میں رکھیں ، آپ کو حقیقی عدالت میں امن ملے گا. جس کا دوست وسعت خدا ہے ، اس شخص کو بالکل کچھ بھی نہیں ہوتا ۔ وہ جو خدا کی محبت کے ساتھ حواریوں ہے, اس کے تمام دکھوں, درد اور شکوک و شبہات دور بھاگ. جس نے خدا کے نام کے جوہر کا لطف اٹھایا ہے ، وہ کسی اور دنیاوی خوشیوں کی طرف سے آمادہ نہیں ہے. جس کا لفظ خدا کی عدالت میں قبول کیا جاتا ہے وہ کسی اور کے لئے ذمہ دار نہیں ہے ۔ وہ جو ایک سے تعلق رکھتے ہیں ، جس کے لئے سب چیزوں کا تعلق ہے ۔ نانک, وہ شخص ہمیشہ امن میں رہتا ہے. وہ شخص جو دکھ اور خوشی دونوں کو سمجھتی ہے ، وہ شخص کسی خوف یا بے چینی کی طرف سے متاثر نہیں کیا جا سکتا. خدا کے دیوتا کے ذہن میں ہمیشہ سے ایک اور نعمت ہے ۔ خُدا کے ساتھ ہمیشہ اُس کے فرمانبردار ہیں ۔ وہ شخص جس کے ذہن میں خدا رہتا ہے جو تمام خدشات سے آزاد ہے اس شخص کے قریب کبھی کوئی پریشانی نہیں آتی ۔ جس شخص کا من تمام شکوک و شبہات سے نجات پا رہا ہے (خدا کی بالادستی کے بارے میں) ، تو وہ شخص موت سے خوفزدہ نہیں ہے ۔ نانک کا کہنا ہے کہ جس شخص میں دل گرو نے خدا کے نام کو دکھایا ہے ، یہ شخص اس طرح محسوس ہوتا ہے کہ اگر تمام خزانہ اس کے پاس آئے ہیں. خدا سمجھ کا ٹھکانا انسانی ذہن میں ہے ، لیکن نایاب ہے جو گرو کے فضل کی طرف سے جانتا ہے. آسمانی خطبہ کے مہکنا پول (خدا کی تعریف کے گیت), صرف اس شخص کی طرف سے لطف اندوز کر رہے ہیں, جو اسے حاصل کرنے کے لئے قسمت میں ہے. جگہ (انسانی دل) جہاں گرو کے گیت کی غیر جانب سے کھیل رہے ہیں وہ منفرد حیرت انگیز بن جاتا ہے. اس میلوڈ فاسکاناٹیس بھی خدا کے اشاروں. مختلف اور بے شمار امن اور اس کے لئے بہت سے ایسے ہیں جہاں خدا کی عقیدت رکھنے والے اور اسے یاد کرتے ہیں ۔ من کی اس حالت میں لامحدود خوشی اور کوئی غم نہیں ہے ، گرو نے نانک کے لئے من کی کیفیت کو برکت دی ہے ۔ مجھے کس قسم کی شکل میں عبادت اور پسند ہونا چاہئے ؟ میرے جسم کو کنٹرول کرنے کے لئے مجھے کیا یوگا کی مشق کرنی چاہئے ؟
کون گُنُ جۄ تُجھُ لےَ گاوءُ ॥
کون بۄل پارب٘رہم ریِجھاوءُ ॥1॥ رہاءُ ॥
کون سُ پۄُجا تیری کرءُ ॥
کون سُ بِدھِ جِتُ بھوجل ترءُ ॥2॥
کون تپُ جِتُ تپیِیا ہۄءِ ॥
کونُ سُ نامُ ہئُمےَ ملُ کھۄءِ ॥3॥
گُݨ پۄُجا گِیان دھِیان
نانک سگل گھال ॥
جِس کرِ کِرپا ستِگُرُ مِلےَ دئِیال ॥4॥
تِس ہی گُنُ تِن ہی پ٘ربھُ جاتا ॥
جِس کی مانِ لےءِ سُکھداتا ॥1॥ رہاءُ دۄُجا ॥ 36 ॥ 105 ॥
گئُڑی محلا 5॥
آپن تنُ نہی جا کۄ گربا ॥
راج مِلکھ نہی آپن دربا ॥1॥
آپن نہی کا کءُ لپٹائِئۄ ۔ ॥
آپن نامُ ستِگُر تے پائِئۄ ॥1॥ رہاءُ ॥
سُت بنِتا آپن نہی بھائی ॥
اِسٹ میِت آپ باپُ ن مائی ॥2॥
سُئِنا رۄُپا پھُنِ نہی دام ॥
ہیَور گیَور آپن نہی کام ॥3॥
کہُ نانک جۄ گُرِ بخشِ مِلائِیا ॥
تِس کا سبھُ کِچھُ
جِس کا ہرِ رائِیا ॥4॥ 37 ॥ 106 ॥
گئُڑی محلا 5॥
گُر کے چرݨ اۄُپرِ میرے ماتھے ॥
تا تے دُکھ میرے سگلے لاتھے ॥1॥
ستِگُر اپُنے کءُ قُربانی ॥
آتم چیِنِ پرم رنّگ مانی ॥1॥ رہاءُ ॥
چرݨ ریݨُ گُر کی مُکھِ لاگی ॥
اہنّبُدھِ تِنِ سگل تِیاگی ॥2॥
گُر کا سبدُ لگۄ منِ میِٹھا ॥
پارب٘رہمُ تا تے مۄہِ ڈیِٹھا ॥3॥
گُرُ سُکھداتا گُرُ کرتارُ ॥
جیء پ٘راݨ نانک گُرُ ادھارُ ॥4॥ 38 ॥ 107 ॥
گئُڑی محلا 5॥
رے من میرے تۄُنّ تا کءُ آہِ ॥
جا کےَ اۄُݨا کچھہۄُ ناہِ ॥1॥
ہرِ سا پ٘ریِتمُ کرِ من میِت ۔ ॥
پ٘ران ادھارُ راکھہُ سد چیِت ॥1॥ رہاءُ ॥
رے من میرے تۄُنّ تا کءُ سیوِ ॥
آدِ پُرکھ اپرنّپر دیو ॥2॥
تِسُ اۄُپرِ من کرِ تۄُنّ آسا ॥
آدِ جُگادِ جا کا بھرواسا ॥3॥
جا کی پ٘ریِتِ سدا سُکھُ ہۄءِ ॥
نانکُ گاوےَ گُر مِلِ سۄءِ ॥4॥ 39 ॥ 108 ॥
گئُڑی محلا 5॥
میِتُ کرےَ سۄئی ہم مانا ॥
میِت کے کرتب کُسل سمانا ॥1॥
ایکا ٹیک میرے منِ چیِت ॥
جِسُ کِچھُ کرݨا سُ ہمرا میِت ॥1॥ رہاءُ ॥
میِتُ ہمارا ویپرواہا ॥
گُر کِرپا تے مۄہِ اسناہا ॥2॥
میِتُ ہمارا انّترجامی ॥
سمرتھ پُرکھُ پارب٘رہمُ سُیامی ॥3॥
ہم داسے تُم ٹھاکُر میرے ॥
وہ کیا فضیلت ہے جس سے میں تم سے گیت سکتا ہوں ؟ اے خُدا ، وہ لفظ کیا ہے جس سے میں تجھے خوش کروں ؟ میں آپ کے لئے کس قسم کی عبادت خدمت انجام دوں ؟ اس سے کیا راستہ ہے ، میں کے خوفناک دنیا سمندر میں پار کر سکتا ہوں ؟ وہ تپسیا کیا ہے جس سے میں نادم بن سکتا ہوں ؟ وہ نام کیا ہے جس سے انانیت کی گندگی دور دھویا جا سکتی ہے ؟ اے ‘ نانک, ایک شخص کی تمام کوششوں, جیسا کہ عبادت, خدا کی تعریف, الہی علم اور فضائل صرف کامیاب ہو, جب رحم (خدا) اپنی مہربانی سے پتہ چلتا ہے, اور ایک حقیقی گرو سے ملاقات. صرف اس شخص کو اس طرح کی میرٹ حاصل ہے ، اور صرف اس شخص نے خدا ، امن عطا خدا کی طرف سے قبول کیا جاتا ہے جس کی دعا کو احساس ہوا ہے. جس جسم کو تم بہت فخر ہو ، ہمیشہ کے لئے آپ سے تعلق نہیں رکھتا ہے. قوت ، جائداد اور دولت ہمیشہ تیری نہیں ۔ || 1 | | وہ تمہارا نہیں ہیں ، تو آپ ان سے کیوں چپٹنا ہیں ؟ صرف نام ، خُدا کا نام ، تیرا ہے ۔ یہ سچا گرو سے موصول ہوتا ہے. بچوں, شریک حیات اور بہن بھائیوں تمہارا نہیں ہیں. پیارے دوستو ، ماں اور باپ تمہارا نہیں ہے ۔ || 2 | | سونا ، چاندی اور پیسے تمہارا نہیں ہیں ۔ ٹھیک گھوڑوں اور شاندار ہاتھی کبھی بھی آپ کے لئے استعمال نہیں کر رہے ہیں. نانک کہتے ہیں کہ جس کا گرو خدا کے ساتھ ہے اس کے فضل کے وسیلہ سے سب کچھ اس سے تعلق رکھتا ہے جس کا کارساز خود ہی خدا ہے ۔ گرو کے پاؤں (ان کی تعلیمات) میرے ذہن میں دی گئی ہیں ، اور ان تعلیمات کی پیروی کرکے میرے تمام گھریلوالجھنوں غائب ہوگئے ہیں ۔ میں اپنے سچے گرو سے اپنے آپ کو وقف کرتا ہوں ، جس کا فضل ، میں نے خود بیداری حاصل کی ہے اور اب میں سپریم نعمتوں سے لطف اندوز ہوں ۔ میں نے یہ سنا ہے کہ گرو کی تعلیمات کو عاجزی کے ساتھ ، جس نے میری تمام تکبر عقل کو ہٹا دیا ہے ۔ گرو کا لفظ میرے ذہن کو خوشگوار لگتا ہے ، اور گرو کے کلام کے ذریعہ میں نے سپریم خدا کو دیکھا. گرو صلح کا بخشنے والا ہے ۔ گرو خالق ہے. اے نانک ، گرو زندگی اور روح کی سانس کی حمایت ہے. اے میرے ذہن میں جو کچھ نہیں کمی اسے تلاش کرو ۔ || 1 | | اے میرے ذہن میں خدا کو اپنا دوست بنا ۔ اسے اپنے ذہن میں مسلسل رکھیں ۔ وہ زندگی کی سانس کی حمایت ہے ۔ اے میرے ذہن ، اس کی خدمت کرو (محبت اور عقیدت کے ساتھ اسے یاد رکھیں) ، جو وسعت قیمتی ہے اور کسی حد سے باہر ہے. اے ‘ میرے ذہن ، صرف ایک پر اپنی امیدوں کو پن کریں ، جو کہ تمام مخلوقات کی حمایت ہے ، وقت کے آغاز سے ، اور عمر بھر میں ۔ اُس کی محبّت ابدی سلامتی لاتی ہے ۔ گرو سے ملاقات ، نانک ان کی شاندار تعریف گاتی. جو کچھ میرے دوست ہے ، میں اسے قبول بچوشی. میرے دوست کے اعمال مجھ سے خوش ہیں. l میرے ہوش میں دماغ کے اندر صرف ایک ضمانت ہے, کہ جو کچھ بھی کرنا ہے میرے دوست ہے. میرے دوست-خدا لاپرواہ ہے. (وہ کسی چیز پر انحصار نہیں کرتے) ۔ گرو کے فضل سے ، میں اُس کو اپنی محبت دیتا ہوں ۔ (میں اس کے قریب آیا). میرا دوست (خدا) سب ذہنوں سے واقف ہے ۔ انہوں نے کہا کہ تمام طاقتور ہے, تمام وسعت سپریم خدا اور ماسٹر. اے خُدا ، میں تیرا خادم ہوں اور تُو میرا آقا ہے ۔
مانُ مہتُ نانک پ٘ربھُ تیرے ॥4॥ 40 ॥ 109 ॥
گئُڑی محلا 5॥
جا کءُ تُم بھۓ سمرتھ انّگا ॥
تا کءُ کچھُ ناہی کالنّگا ॥1॥
مادھءُ جا کءُ ہےَ آس تُماری ॥
تا کءُ کچھُ ناہی سنّساری ॥1॥ رہاءُ ॥
جا کےَ ہِردےَ ٹھاکُرُ ہۄءِ ॥
تا کءُ سہسا ناہی کۄءِ ॥2॥
جا کءُ تُم دیِنی پ٘ربھ دھیِر ॥
تا کےَ نِکٹِ ن آوےَ پیِر ॥3॥
کہُ نانک مےَ سۄ گُرُ پائِیا ॥
پارب٘رہم پۄُرن دیکھائِیا ॥4॥ 41 ॥ 110 ॥
گئُڑی محلا 5॥
دُلبھ دیہ پائی وڈبھاگی ॥
نامُ ن جپہِ تے آتم گھاتی ॥1॥
مرِ ن جاہی جِنا بِسرت رام ॥
نام بِہۄُن جیِون کئُن کام ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
کھات پیِت کھیلت ہست بِستھار ॥
کون ارتھ مِرتک سیِگار ॥2॥
جۄ ن سُنہِ جسُ پرماننّدا ॥
پسُ پنّکھی ت٘رِگد جۄنِ تے منّدا ॥3॥
کہُ نانک گُرِ منّت٘رُ د٘رِڑائِیا ॥
کیول نامُ رِد ماہِ سمائِیا ॥4॥ 42 ॥ 111 ॥
گئُڑی محلا 5॥
کا کی مائی کا کۄ باپ ۔ ॥
نام دھاریِک جھۄُٹھے سبھِ ساک ॥1॥
کاہے کءُ مۄُرکھ بھکھلائِیا ॥
مِلِ سنّجۄگِ حُکمِ تۄُنّ آئِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
ایکا ماٹی ایکا جۄتِ ॥
ایکۄ پونُ کہا کئُنُ رۄتِ ۔ ॥2॥
میرا میرا کرِ بِللاہی ॥
مرݨہارُ اِہُ جیِئرا ناہی ॥3॥
کہُ نانک گُرِ کھۄلے کپاٹ ॥
مُکتُ بھۓ بِنسے بھ٘رم تھاٹ ॥4॥ 43 ॥ 112 ॥
گئُڑی محلا 5॥
وڈے وڈے جۄ دیِسہِ لۄگ ॥
تِن کءُ بِیاپےَ چِنّتا رۄگ ॥1॥
کئُن وڈا مائِیا وڈِیائی ॥
سۄ وڈا جِنِ رام لِو لائی ॥1॥ رہاءُ ॥
بھۄُمیِیا بھۄُمِ اۄُپرِ نِت لُجھےَ ॥
چھۄڈِ چلےَ ت٘رِسنا نہی بُجھےَ ॥2॥
کہُ نانک اِہُ تتُ بیِچارا ॥
بِنُ ہرِ بھجن ناہی چھُٹکارا ॥3॥ 44 ॥ 113 ॥
گئُڑی محلا 5॥
پۄُرا مارگُ پۄُرا اِسنانُ ॥
سبھُ کِچھُ پۄُرا ہِردےَ نامُ ॥1॥
پۄُری رہی جا پۄُرےَ راکھی ॥
پارب٘رہم کی سرݨِ جن تاکی ॥1॥ رہاءُ ॥
پۄُرا سُکھُ پۄُرا سنّتۄکھُ ॥
پۄُرا تپُ پۄُرن راجُ جۄگُ ॥2॥
ہرِ کےَ مارگِ پتِت پُنیِت ॥
پۄُری سۄبھا پۄُرا لۄکیِک ॥3॥
کرݨہارُ سد وسےَ ہدۄُرا ॥
کہُ نانک میرا ستِگُرُ پۄُرا ॥4॥ 45 ॥ 114 ॥
گئُڑی محلا 5॥
سنّت کی دھۄُرِ مِٹے اگھ کۄٹ ॥
اے ‘ نانک ، تمام تر عزت اور جلال آپ کے خادم بننے کی طرف سے حاصل کی جاتی ہے ۔ اے ‘ تمام طاقتور خدا ، جس کو آپ حمایت کرتے ہیں ، کے داغ اس پر نہیں رہیں گے. اے خدا ، جو آپ کی حمایت پر منحصر ہے ، وہ دنیاوی لوگوں کی حمایت کی پرواہ نہیں کرتا. وہ شخص جو ہمیشہ محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد کرتا ہے ، کوئی تشویش اس پر اثر انداز کر سکتا ہے. اے خدا ، جس نے آپ کو سکون دیا ہے ، اس کے قریب کوئی درد یا غم نہیں آتا. نانک کا کہنا ہے کہ ، میں نے اس گرو کو پایا ہے ، جنہوں نے مجھے کامل ، تمام وسعت سپریم خدا کو دکھایا ہے. یہ انسانی جسم بہت مشکل ہے ۔ یہ صرف عظیم خوش قسمتی سے حاصل کیا جاتا ہے. جو لوگ خدا کے نام پر مراقبہ نہیں کرتے ، وہ روحانی خودکش کا ارتکاب کر رہے ہیں. وہ کیوں نہیں مرتے جو خدا کے نام کو بھول جاتے ہیں ؟ انسانی زندگی خدا کے نام کے بغیر مکمل طور پر بیکار ہے. (خدا کے نام پر مراقبہ کے بغیر, لوگ ان کے وقت خرچ کرتے ہیں) کھانے, پینے, کھیل, ہنسنا اور دکھا, لیکن خدا کے نام کے بغیر وہ مردہ افراد کی طرح ہیں ، اور ان کی تمام سرگرمیوں امبیلاشانگ مردہ لاشیں کی طرح ہیں. جانوروں ، پرندوں یا کیپٹن مخلوق سے زیادہ بدتر ہیں. نانک کہتے ہیں ، جس کے ذہن میں اس شخص نے اپنے کلام کو مضبوطی سے پرتیاروپت کیا ہے ، صرف خدا کا نام اس شخص کے دماغ میں موجود ہے. پانچویں گرو کی طرف سے ، ریگاوری: (حقیقت میں) کوئی بھی کسی کی ماں یا باپ ہمیشہ کے لئے نہیں ہے. ان تمام تعلقات مختصر رہتے ہیں اور نام میں صرف. “احمق ، آپ کیوں نظر آتے ہیں جیسا کہ آپ نے ایک ڈراؤنا خواب دیکھا ہے ؟ یہ آپ کے ماضی کے اعمال اور خدا کے حکم کی وجہ سے ہے کہ آپ اس دنیا میں آئے ہیں. تمام انسانوں کو اسی عناصر سے بنا رہے ہیں اور ایک ہی روح ہے ، اور اسی زندگی سانس. پس کیوں اور کس کے لئے کسی کو رونا ہے ؟ لوگ رونے اور ولاپ کرتے ہیں کہ میرے نزدیک اور عزیز کا انتقال ہو گیا ہے ، یہ روح بے جان نہیں ہے ۔ نانک کا کہنا ہے کہ, گرو نے اپنے تمام شکوک و شبہات کو ہٹا دیا ہے. میں آزاد ہوں ، اور میرے شکوک و شبہات داسپاللاد رہے ہیں. وہ لوگ جو عظیم اور طاقتور لگتے ہیں ، پریشانی کی بیماری سے متاثر ہوتے ہیں. || 1 | | مایا کی عظمت سے کون بڑا ہے ؟ وہ اکیلا ہی عظیم ہے ، جو محبت خدا کے باخبر ہے ۔ مالک مکان ہر روز اپنی زمین پر لڑائی کا مقابلہ کرتے تھے ۔ یہاں تک کہ دنیا سے روانہ ہونے کے باوجود زمین کے لئے اس شخص کی خواہش بجھتی نہیں ہے ۔ نانک کہتے ہیں کہ اس نے اس سچائی کو محتاط تاخراورآرام کے بعد محسوس کیا ہے کہ خدا کے نام پر مراقبہ کے بغیر دنیاوی خواہشات سے کوئی فرار نہیں ۔ کامل راہ ہے ۔ کامل صفائی غسل ہے. (سب کچھ کامل ہے ، اگر نام دل میں ہے. | | 1 | | وہ کفر جنہوں نے تمام وسعت خدا کی پناہ گاہ کی کوشش کی ہے ، ان کے اعزاز کامل رہتا ہے ، کیونکہ کامل خدا نے اسے محفوظ کیا. (وہ شخص جو محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد کرتا ہے) ، کامل امن میں ہے اور ان کی زندگی میں مکمل طور پر مواد ہے. اُس کی توبہ کامل تصور کی جاتی ہے اور خُدا کے ساتھ دنیاوی بادشاہت اور کامل اتحاد دونوں حاصل کرتا ہے ۔ محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد کرتے ہوئے ، یہاں تک کہ بدترین گنہگار مقدس ہیں ، وہ خدا کی عدالت میں کامل جلال حاصل کرتے ہیں اور دنیاوی لوگوں کے درمیان مکمل احترام کو برقرار رکھتے ہیں. نانک کہتے ہیں ، وہ جو میرے کامل سچے گرو سے ملاقات کرتا ہے وہ ہمیشہ اس کے علاوہ موجود خالق کو دیکھنے کے قابل ہے. گرو کی تعلیمات کی پیروی کرنے والے لاکھوں گناہوں کو عاجزی سے دور کیا جاتا ہے ۔

سنّت پ٘رسادِ جنم مرݨ تے چھۄٹ ॥1॥
سنّت کا درسُ پۄُرن اِسنانُ ॥
سنّت ک٘رِپا تے جپیِۓَ نامُ ॥1॥ رہاءُ ॥
سنّت کےَ سنّگِ مِٹِیا اہنّکارُ ॥
د٘رِسٹِ آوےَ سبھُ ایکنّکارُ ॥2॥
سنّت سُپ٘رسنّن آۓ وسِ پنّچا ॥
انّم٘رِتُ نامُ رِدےَ لےَ سنّچا ॥3॥
کہُ نانک جا کا پۄُرا کرم ॥
تِسُ بھیٹے سادھۄُ کے چرن ॥4॥ 46 ॥ 115 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ہرِ گُݨ جپت کملُ پرگاسےَ ॥
ہرِ سِمرت ت٘راس سبھ ناسےَ ॥1॥
سا متِ پۄُری جِتُ ہرِ گُݨ گاوےَ ॥
وڈےَ بھاگِ سادھۄُ سنّگُ پاوےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
سادھسنّگِ پائیِۓَ نِدھِ ناما ॥
سادھسنّگِ پۄُرن سبھِ کاما ॥2॥
ہرِ کی بھگتِ جنمُ پرواݨُ ॥
گُر کِرپا تے نامُ وکھاݨُ ॥3॥
کہُ نانک سۄ جنُ پروانُ ॥
جا کےَ رِدےَ وسےَ بھگوانُ ॥4॥ 47 ॥ 116 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ایکسُ سِءُ جا کا منُ راتا ॥
وِسری تِسےَ پرائی تاتا ॥1॥
بِنُ گۄبِنّد ن دیِسےَ کۄئی ॥
کرن کراون کرتا سۄئی ॥1॥ رہاءُ ॥
منہِ کماوےَ مُکھِ ہرِ ہرِ بۄلےَ ॥
سۄ جنُ اِت اُت کتہِ ن ڈۄلےَ ॥2॥
جا کےَ ہرِ دھنُ سۄ سچ ساہُ ॥
گُرِ پۄُرےَ کرِ دیِنۄ وِساہُ ॥3॥
جیِون پُرکھُ مِلِیا ہرِ رائِیا ॥
کہُ نانک پرم پدُ پائِیا ॥4॥ 48 ॥ 117 ॥
گئُڑی محلا 5॥
نامُ بھگت کےَ پ٘ران ادھارُ ॥
نامۄ دھنُ نامۄ بِئُہارُ ॥1॥
نام وڈائی جنُ سۄبھا پاۓ ॥
کرِ کِرپا جِسُ آپِ دِواۓ ॥1॥ رہاءُ ॥
نامُ بھگت کےَ سُکھ استھانُ ॥
نام رتُ سۄ بھگتُ پروانُ ॥2॥
ہرِ کا نامُ جن کءُ دھارےَ ॥
ساسِ ساسِ جنُ نامُ سمارےَ ॥3॥
کہُ نانک جِسُ پۄُرا بھاگُ ॥
نام سنّگِ تا کا منُ لاگُ ॥4॥ 49 ॥ 118 ॥
گئُڑی محلا 5॥
سنّت پ٘رسادِ ہرِ نامُ دھِیائِیا ॥
تب تے دھاوتُ منُ ت٘رِپتائِیا ॥1॥
سُکھ بِس٘رامُ پائِیا گُݨ گاءِ ॥
س٘رمُ مِٹِیا میری ہتی بلاءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
چرن کمل ارادھِ بھگونّتا ॥
ہرِ سِمرن تے مِٹی میری چِنّتا ॥2॥
سبھ تجِ اناتھُ ایک سرݨِ آئِئۄ ॥
اۄُچ استھانُ تب سہجے پائِئۄ ॥3॥
دۄُکھُ دردُ بھرمُ بھءُ نسِیا ॥
کرݨہارُ نانک منِ بسِیا ॥4॥ 50 ॥ 119 ॥
گئُڑی محلا 5॥
کر کرِ ٹہل رسنا گُݨ گاوءُ ॥
سنتوں کے فضل سے ، ایک پیدائش اور موت کے ادوار سے جاری کیا جاتا ہے. سنتوں کی مبارک رویا مقدس مقامات پر ایک کامل غسل کی طرح ہے. سنتوں کے فضل سے ، ایک خدا کے نام پر مراقبہ کرنا شروع ہوتا ہے. سنتوں کی جماعت میں ، انانیت کو تباہ کر دیا جاتا ہے ، اور خدا ہر جگہ وسعت دیکھا جاتا ہے. سنتوں کی خوشی سے ، پان کنٹرول کے تحت آتے ہیں ، اور شخص اپنے دل میں خدا کے مہکنا نام جمع کرتا ہے. نانک کہتے ہیں کہ جس کا کرم (تقدیر) کامل ہے ، پاک کے قدموں کو چھوتی ہے ۔ (گرو کے ساتھ ملاقات کی قسمت ہے). خدا کے فضائل مراقبہ, ایک خوش محسوس ہوتا ہے. محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد کر کے ، تمام خوف داسپاللاد ہیں. کامل وہ عقل ہے جس کے وسیلہ سے شاندار خدا کی تمجید ہوتی ہے ۔ تاہم ، یہ کامل عقل اس شخص کی طرف سے حاصل کی جاتی ہے جو عظیم خوش قسمتی سے مقدس جماعت کو ڈھونڈتا ہے. سادہ (مقدس جماعت) میں ، نام کا خزانہ حاصل کیا جاتا ہے. اور مقدسوں کی صحبت میں تمام کاموں کو پورا کیا جاتا ہے ۔ خدا کی عقیدت کی عبادت کے ذریعے ، ایک کی زندگی کی منظوری دے دی ہے. گرو کے فضل سے ، ایک نام ، خدا کا نام منتروں. نانک کہتے ہیں کہ خُدا کی عدالت میں حلیم ہونا قبول کی جاتی ہے ، جس کے اندر خُدا کا نام رہتا ہے ۔ جس شخص کا من خدا کی محبت سے حواریوں ہے وہ دوسروں کے ساتھ حسد تاخیر ہے ۔ وہ خُدا کے علاوہ کوئی اَور نہیں دیکھتا ۔ اس کا خیال ہے کہ یہ وہی خالق ہے جو ہر چیز کا سبب اور عمل ہے ۔ وہ شخص جو خدا کے نام پر یاد ذہن کی مکمل توجہ کے ساتھ کرتا ہے ، اس شخص نے اس دنیا یا اگلے دنیا میں کبھی نہیں. نام کا مال ہے جو شخص واقعی امیر ہے. کامل گرو نے خدا کے ساتھ اس شخص کی شناخت قائم کی ہے. جس نے خدا کو احساس کیا ہے ، جو سب وسعت ہے اور سب کی زندگی کی حمایت ہے. نانک کہتے ہیں کہ اس شخص نے سپریم روحانی حیثیت حاصل کی ہے ۔ خدا کا نام حیات کا دم ہے ۔ نام ان کا مال ہے اور نام سچی تجارت ہے ۔ خدا کے نام سے ، ایک یہاں اور اس کی عدالت میں جلال اور عزت حاصل. لیکن صرف خدا اپنے رحم میں اس گرو کے ذریعے رکھے ہے. اس کے دیوتا نے خدا کے نام سے نعمتوں کی حالت حاصل کی ۔ نام کے ساتھ حواریوں ہے جو سب خدا کی عدالت میں منظور شدہ ہے. خدا کا نام ان کے حامی کی حمایت ہے. ہر سانس کے ساتھ ، خدا کے نام پر ایک رہتا ہے. نانک کہتے ہیں ، جو کہ کامل مقدر ہے ، صرف اُس کا من خُدا کے نام سے باخبر ہے ۔ جب سے میں نے خدا کے نام پر مراقبہ ہے ، گرو کے فضل سے ، میرا آوارہ دماغ مطمئن ہے. اُس کی حمد کو گانا ، میں نے خُدا کو ، نعمتوں کے فراہم کنندہ کو محسوس کیا ہے ۔ میری مشکلات ختم ہو چکی ہیں ، اور شیطان تباہ ہو گیا ہے. میری دولت کے لیے میری مشقت بند ہو گئی ہے ، جیسا کہ خُدا کو یاد رکھنا ، میرے اندر دنیاوی خواہشات کا بھوت ذبح کیا گیا ہے ۔ نرمل الہی الفاظ پر روشنی ڈالتے ہوئے, اور خدا کے نام پر مراقبہ کی طرف سے تمام میری تمام خدشات کے آخر میں آئے ہیں. جب تمام روگردانی کی حمایت کرتا ہے ، میں خدا کے مقدس کی طرح ، یتیم کی طرح آیا ہوں ، اس کے بعد سے ، انٹرویو ، میں نے خوشی کی سپریم حیثیت حاصل کی ہے. میرے تمام دکھوں, درد, شکوک و شبہات اور خدشات دور بھاگ گیا ہے, اے نانک, خالق میرے ذہن میں رہنے کے لئے آئے ہیں. میرے ہاتھوں سے میں اس کی مخلوق کی خدمت کرتا ہوں ۔ میری زبان سے میں اپنی شاندار حمد کرتا ہوں ۔

چرن ٹھاکُر کےَ مارگِ دھاوءُ ॥1॥
بھلۄ سمۄ سِمرن کی بریِیا ॥
سِمرت نامُ بھےَ پارِ اُتریِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
نیت٘ر سنّتن کا درسنُ پیکھُ ॥
پ٘ربھ اوِناسی من مہِ لیکھُ ॥2॥
سُݨِ کیِرتنُ سادھ پہِ جاءِ ॥
جنم مرݨ کی ت٘راس مِٹاءِ ॥3॥
چرݨ کمل ٹھاکُر اُرِ دھارِ ॥
دُلبھ دیہ نانک نِستارِ ॥4॥ 51 ॥ 120 ॥
گئُڑی محلا 5॥
جا کءُ اپنی کِرپا دھارےَ ॥
سۄ جنُ رسنا نامُ اُچارےَ ॥1॥
ہرِ بِسرت سہسا دُکھُ بِیاپےَ ॥
سِمرت نامُ بھرمُ بھءُ بھاگےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
ہرِ کیِرتنُ سُݨےَ ہرِ کیِرتنُ گاوےَ ॥
تِسُ جن دۄُکھُ نِکٹِ نہی آوےَ ॥2॥
ہرِ کی ٹہل کرت جنُ سۄہےَ ॥
تا کءُ مائِیا اگنِ ن پۄہےَ ॥3॥
منِ تنِ مُکھِ ہرِ نامُ دئِیال ॥
نانک تجیِئلے اورِ زنّجال ॥4॥ 52 ॥ 121 ॥
گئُڑی محلا 5॥
چھاڈِ سِیانپ بہُ چتُرائی ॥
گُر پۄُرے کی ٹیک ٹِکائی ॥1॥
دُکھ بِنسے سُکھ ہرِ گُݨ گاءِ ॥
گُرُ پۄُرا بھیٹِیا لِو لاءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
ہرِ کا نامُ دیِئۄ گُرِ منّت٘رُ ॥
مِٹے وِسۄُرے اُتری چِنّت ॥2॥
اند بھۓ گُر مِلت ک٘رِپال ॥
کرِ کِرپا کاٹے جم جال ॥3॥
کہُ نانک گُرُ پۄُرا پائِیا ॥
تا تے بہُرِ ن بِیاپےَ مائِیا ॥4॥ 53 ॥ 122 ॥
گئُڑی محلا 5॥
راکھِ لیِیا گُرِ پۄُرےَ آپِ ॥
منمُکھ کءُ لاگۄ سنّتاپُ ॥1॥
گُرۄُ گُرۄُ جپِ میِت ہمارے ۔ ॥
مُکھ اۄُجل ہۄوہِ دربارے ॥1॥ رہاءُ ॥
گُر کے چرݨ ہِردےَ وساءِ ॥
دُکھ دُسمن تیری ہتےَ بلاءِ ॥2॥
گُر کا سبدُ تیرےَ سنّگِ سہائی ॥
دئِیال بھۓ سگلے جیء بھائی ۔ ॥3॥
گُرِ پۄُرےَ جب کِرپا کری ॥
بھنتِ نانک میری پۄُری پری ॥4॥ 54 ॥ 123 ॥
گئُڑی محلا 5॥
انِک رسا کھاۓ جیَسے ڈھۄر ॥
مۄہ کی جیوری بادھِئۄ چۄر ॥1॥
مِرتک دیہ سادھسنّگ بِہۄُنا ॥
آوت جات جۄنی دُکھ کھیِنا ॥1॥ رہاءُ ॥
انِک بست٘ر سُنّدر پہِرائِیا ॥
جِءُ ڈرنا کھیت ماہِ ڈرائِیا ॥2॥
سگل سریِر آوت سبھ کام ॥
نِہپھل مانُکھُ جپےَ نہی نام ॥3॥
کہُ نانک جا کءُ بھۓ دئِیالا ॥
سادھسنّگِ مِلِ بھجہِ گۄپالا ॥4॥ 55 ॥ 124 ॥
گئُڑی محلا 5॥
اور میرے پاؤں کے ساتھ ، میں مقدس جماعت میں شامل ہونے کے لئے راستے پر چلتا ہوں. انسانی پیدائش خُدا کے نام پر مراقبہ کرکے خدا کو یاد رکھنے کا واحد اچھا موقع ہے ، ہم کی خوفناک دنیا سمندر سے زیادہ پار کرتے ہیں ۔ اپنی آنکھوں کے ساتھ مقدسوں کی مبارک رویا اور اپنے دماغ میں جمانا خدا کے نام کو دیکھ کر ۔ (اے میرے دوست) مقدس جماعت میں خدا کی تعریف کی بات سنیں ، اور اس طرح پیدائش اور موت کے ادوار میں جانے کے خوف کو ختم. اپنے دل میں خُدا کے نرمل نام کو نانک ، یہ انسانی جسم بہت مشکل ہے ۔ خدا کے نام پر مراقبہ کرتے ہوئے کے دنیاوی سمندر میں اسے فیری کریں ۔ وہ لوگ جن پر خدا خود اس کی رحمت کو بارش کرتا ہے اس شخص نے خدا کے نام کو محبت اور عقیدت کے ساتھ الزماں ہے ۔ خدا کو بھول کر ، خوف اور غم تمہیں جا پکڑے گا ۔ لیکن خدا کے نام پر مراقبہ, شک اور خوف روانہ ہو جائے گا. وہ شخص جو سنتا ہے اور خدا کی حمد کرتا ہے ، اس شخص کے قریب کوئی درد یا غم نہیں آتا ۔ خدا کی مخلوق کی خدمت اور محبت عقیدت کے ساتھ اس پر مراقبہ کرنے سے, شخص کی زندگی خوبصورت ہو جاتا ہے. کیونکہ مایا کی آگ اسے چھو نہیں دیتی ۔ “اے نانک ، رحم خدا کا نام اس شخص کے ذہن اور جسم میں رہتا ہے ، جو تمام دنیاوی جھگڑوں کو منحرف ہے ۔ گاوری, پانچویں گرو کی طرف سے: اپنے چالاکی کو ترک, اور آپ کے ہوشیار چالیں. کامل گرو کی حمایت کی تلاش. آپ کا درد دور ہو جائے گا ، آپ امن میں خدا کی شاندار تعریف گائیں گے. کامل گرو سے ملاقات ، اپنے آپ کو خدا کی محبت میں جذب کیا جائے. گرو نے مجھے خدا کے نام کا منتر دیا ہے (الہٰی لفظ) ۔ میرے تمام خدشات بھول گئے ہیں ، اور میری تشویش چلا گیا ہے. رحم گرو کے ساتھ ملاقات ، میں ایکسٹیسی میں ہوں. اُس کی رحمت کو بارش ، اُس نے موت کے پھسری کو کاٹ دیا ہے ۔ نانک کا کہنا ہے کہ ایک کامل گرو کی رہنمائی حاصل کی ہے جس میں, مایا (دنیاوی منسلکہ) اس شخص کو دوبارہ تکلیف نہیں دیتا ۔ گاوری, پانچویں گرو کی طرف سے: کامل گرو خود مجھے بچا لیا ہے. خود کو مانموکہ کی آفت سے متاثر کیا جاتا ہے. اے ‘ میرے دوست ہمیشہ گرو کا کلام یاد رکھیں ۔ ایسا کرنے سے آپ خدا کی عدالت میں عزت حاصل کریں گے. من میں گرو کی تعلیمات کو انشرانانگ کر کے ، اپنے تمام تر ، دشمنوں اور آفتوں کو تباہ کیا جائے گا ۔ گرو کے سہاباڈ کا لفظ آپ کے ساتھی اور مددگار ہے. جب تک گرو کا کلام آپ کے ساتھی ہے اور تمام مخلوق کی حمایت آپ کو قسم کی ہو گی. جب کامل گرو نے اپنا فضل حاصل کیا ، نانک کا کہنا ہے ، تو میری تمام کوششیں ثمر آور بن گئیں ۔ خدا کو بھول جانا جو شخص مزیدار عید سے لطف اندوز ہونے میں ملوث رہتا ہے وہ ایک جانور کی طرح کھا رہا ہے. اس کی زندگی ایک چور کی طرح ہے جو دنیاوی طور پر اس کے ساتھ منسلک ہے ۔ سنتوں کی کمپنی کے بغیر رہتا ہے جو ایک ، روحانی طور پر مر جاتا ہے اور اس کے جسم ایک مردہ کی طرح ہے. اس شخص کی روح مسلسل کمزور ہو جاتی ہے ، کیونکہ بار پیدائش اور موت سے درد اور مصائب کی وجہ سے ، وہ خوبصورت لباس کے تمام قسم کے پہنتے ہیں ، لیکن وہ اب بھی میدان میں خوفزدہ بانگ کی طرح لگ رہا ہے ، پرندوں کو خوفناک. تمام جانوروں کے جسم کو کچھ استعمال کرنے کے لئے ڈال دیا جا سکتا ہے ، لیکن کوئی استعمال کی دنیا میں ایک شخص کی آمد ہے ، جو خدا کے نام پر غور نہیں کرتا. نانک کہتے ہیں ، جس پر خدا رحم کرتا ہے ، اس شخص کو مقدس جماعت میں ، محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد ہے.

کلِ کلیس گُر سبدِ نِوارے ॥
آوݨ جاݨ رہے سُکھ سارے ॥1॥
بھےَ بِنسے نِربھءُ ہرِ دھِیائِیا ॥
سادھسنّگِ ہرِ کے گُݨ گائِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
چرن کول رِد انّترِ دھارے ॥
اگنِ ساگر گُرِ پارِ اُتارے ॥2॥
بۄُڈت جات پۄُرےَ گُرِ کاڈھے ॥
جنم جنم کے ٹۄُٹے گاڈھے ॥3॥
کہُ نانک تِسُ گُر بلِہاری ॥
جِسُ بھیٹت گتِ بھئی ہماری ॥4॥ 56 ॥ 125 ॥
گئُڑی محلا 5॥
سادھسنّگِ تا کی سرنی پرہُ ॥
منُ تنُ اپنا آگےَ دھرہُ ॥1॥
انّم٘رِت نامُ پیِوہُ میرے بھائی ۔ ॥
سِمرِ سِمرِ سبھ تپتِ بُجھائی ॥1॥ رہاءُ ॥
تجِ ابھِمانُ جنم مرݨُ نِوارہُ ॥
ہرِ کے داس کے چرݨ نمسکارہُ ॥2॥
ساسِ ساسِ پ٘ربھُ منہِ سمالے ॥
سۄ دھنُ سنّچہُ جۄ چالےَ نالے ॥3॥
تِسہِ پراپتِ جِسُ مستکِ بھاگُ ॥
کہُ نانک تا کی چرݨی لاگُ ॥4॥ 57 ॥ 126 ॥
گئُڑی محلا 5॥
سۄُکے ہرے کیِۓ کھِن ماہے ॥
انّم٘رِت د٘رِسٹِ سنّچِ جیِواۓ ॥1॥
کاٹے کسٹ پۄُرے گُردیو ॥
سیوک کءُ دیِنی اپُنی سیو ॥1॥ رہاءُ ॥
مِٹِ گئی چِنّت پُنی من آسا ॥
کری دئِیا ستِگُرِ گُݨتاسا ॥2॥
دُکھ ناٹھے سُکھ آءِ سماۓ ॥
ڈھیِل ن پری جا گُرِ فُرماۓ ॥3॥
اِچھ پُنی پۄُرے گُر مِلے ॥
نانک تے جن سُپھل پھلے ॥4॥ 58 ॥ 127 ॥
گئُڑی محلا 5॥
تاپ گۓ پائی پ٘ربھِ سانْتِ ॥
سیِتل بھۓ کیِنی پ٘ربھ داتِ ॥1॥
پ٘ربھ کِرپا تے بھۓ سُہیلے ॥
جنم جنم کے بِچھُرے میلے ॥1॥ رہاءُ ॥
سِمرت سِمرت پ٘ربھ کا ناءُ ॥
سگل رۄگ کا بِنسِیا تھاءُ ॥2॥
سہجِ سُبھاءِ بۄلےَ ہرِ باݨی ॥
آٹھ پہر پ٘ربھ سِمرہُ پ٘راݨی ۔ ॥3॥
دۄُکھُ دردُ جمُ نیڑِ ن آوےَ ॥
کہُ نانک جۄ ہرِ گُن گاوےَ ॥4॥ 59 ॥ 128 ॥
گئُڑی محلا 5॥
بھلے دِنس بھلے سنّجۄگ ॥
جِتُ بھیٹے پارب٘رہم نِرجۄگ ॥1॥
اۄہ بیلا کءُ ہءُ بلِ جاءُ ॥
جِتُ میرا منُ جپےَ ہرِ ناءُ ॥1॥ رہاءُ ॥
سپھل مۄُرتُ سپھل اۄہ گھری ॥
جِتُ رسنا اُچرےَ ہرِ ہری ॥2॥
سپھلُ اۄہُ ماتھا سنّت نمسکارسِ ॥
چرݨ پُنیِت چلہِ ہرِ مارگِ ॥3॥
کہُ نانک بھلا میرا کرم ॥
جِتُ بھیٹے سادھۄُ کے چرن ॥4॥ 60 ॥ 129 ॥
گرو کا کلام تمام تر فساد اور غم کو ختم کر چکا ہے ۔ میری آمدات اور راستوں (دنیا کے اندر اور باہر) ختم ہو چکے ہیں اور میں نے تمام قسم کے آرام حاصل کی ہے. سنتوں کی کمپنی میں ، میں نے خدا کی تعریف کی ، اور جب میں بے خوف خدا پر مراقبہ ، میرے تمام خدشات دور غائب. جنہوں نے اپنے دلوں میں خدا کے نرمل نام کو فررید کیا وہ دنیاوی خواہشات کے سمندر میں موجود گرو کی طرف سے بے عیب تھے ۔ جو کے سمندر میں ڈوب رہے تھے وہ گرو انہیں باہر نکالا اور ان کو خدا کے ساتھ جو ان کو بہت سے پیدائش کے لئے جدا کئے گئے تھے ان کو باہر نکال دیا ۔ نانک کہتے ہیں کہ میں اپنی زندگی کو گرو کی طرف وقف کرتا ہوں ، جس کو میں آزاد کرا رہا تھا ۔ مقدس جماعت میں خدا کی پناہ طلب کریں ۔ اس سے پہلے آپ کے جسم اور دماغ کو ہتھیار ڈالنے. اے بھائی ، خدا کے نام کی مہکنا امرت کا لطف. جو محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کے نام پر مراقبہ ہے ، انہوں نے کی آگ سكتا ہے. اپنی انا کو ترک کر اور پیدائش اور موت کے ادوار سے اپنے آپ کو آزاد کر ۔ خُدا کے خادموں کے قدموں کے لیے فروتنی میں جھکنا ۔ خُدا کو اپنے ذہن میں یاد کر ، ہر دم کے ساتھ ۔ صرف خدا کے نام کا مال جمع کرو جو تمہارے ساتھ چلے گا ۔ وہ اکیلا اس دولت کو حاصل ہے جس کی تقدیر میں یہ لکھا ہے ۔ نانک کہتے ہیں ، اے بشر نے خدا کے نام سے اس دولت کو حاصل کیا ہے جو انسانیت کی عاجزی کے ساتھ خدمت. ایک فوری طور پر گرو نے روحانی مردہ لوگوں کو بحال کیا ہے. اُس کی مہکنا نظر میں ارراگاٹیس اور اُن کی جانوں کو بحال کر دیتی ہے ۔ کامل گرو نے اپنی خدمت کے ساتھ اسے برکت دے کر اپنے خادم کی تمام مشکلات کو ہٹا دیا ہے ۔ ان کی تمام پریشانیاں ہٹا دی گئی ہیں اور من کی خواہشات پوری ہو گئی ہیں ۔ جب حقیقی گرو ، فضائل کے خزانہ ، نے اپنی شفقت ظاہر کی ہے ۔ اس میں کوئی تاخیر ہوئی ہے کہ وہ اس کی زندگی میں آ گئے ہیں ، جب گرو لہذا حکم دیتا ہے تو کوئی دیر واقع نہیں ہوتی ۔ وہ جو کامل گرو سے مل چکے ہیں ، ان کی خواہش پوری ہوئی ہے. ‘ ‘ نانک, ان لوگوں کی زندگی کو زیادہ تر کامیاب اور مفید بن گیا ہے. ہمارے تمام برائیوں چلے گئے ہیں ۔ خُدا نے ہمیں امن اور سکون کے ساتھ پوچھ گچھ ہے ۔ وہ جو خدا اپنے نام کا تحفہ دیتا ہے ، بہت پرامن ہو جاتا ہے ۔ خدا کے فضل سے ، وہ آرام دہ ہو گئے ہیں. وہ جو بہت سے پیدائش کے لئے اس سے جدا کئے گئے تھے ، خدا نے محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد کرتے ہوئے ان کے ساتھ ان کو دوبارہ متحد کیا ہے ، تمام بیماریوں کی بنیادی وجہ تباہ ہو گئی ہے. بدیہی امن اور جاپ میں ، وہ الہی الفاظ (گوربانا) کو برقرار رکھتا ہے. اے انسانوں ، آپ ہمیشہ محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا یاد رکھنا. درد ، دکھ اور موت کا خوف یہاں تک کہ کوئی بھی نہیں ہے ، جو خدا کی شاندار تعریف کو گاتی ہیں ، کہتے ہیں کہ نانک ، مبارک دن ہیں ، اور مبارک ہو یونین کے لمحات ہیں ، جب میں نے سپریم خدا کی نظر کو دیکھتے ہیں ، جو مایا سے علیحدہ ہے. میں اُس وقت کی قربانی میں ہوں ، جب میرا من محبت اور عقیدت کے ساتھ خُدا کو یاد کرتا ہے ۔ مبارک ہے وہ لمحہ ہے اور مُبارک اُس وقت ہے جب میری زبان خُدا کے نام کی منتروں ہے ۔ مبارک ہے وہ پیشانی جو مقدسوں کی کمانیں ہے ۔ مقدس وہ پاؤں ہیں جو پیتھہول جماعت پر عمل کرتے ہیں ۔ نانک کا کہنا ہے کہ میرا یہ کام میرے لئے تھا جس نے مجھے گرو سے ملاقات کی ۔

گئُڑی محلا 5॥
گُر کا سبدُ راکھُ من ماہِ ॥
نامُ سِمرِ چِنّتا سبھ جاہِ ॥1॥
بِنُ بھگونّت ناہی ان کۄءِ ॥
مارےَ راکھےَ ایکۄ سۄءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
گُر کے چرݨ رِدےَ اُرِ دھارِ ॥
اگنِ ساگرُ جپِ اُترہِ پارِ ॥2॥
گُر مۄُرتِ سِءُ لاءِ دھِیانُ ॥
ایِہا اۄُہا پاوہِ مانُ ॥3॥
سگل تِیاگِ گُر سرݨی آئِیا ॥
مِٹے انّدیسے نانک سُکھُ پائِیا ॥4॥ 61 ॥ 130 ॥
گئُڑی محلا 5॥
جِسُ سِمرت دۄُکھُ سبھُ جاءِ ॥
نامُ رتنُ وسےَ منِ آءِ ॥1॥
جپِ من میرے گۄوِنّد کی باݨی ॥
سادھۄُ جن رامُ رسن وکھاݨی ॥1॥ رہاءُ ॥
اِکسُ بِنُ ناہی دۄُجا کۄءِ ॥
جا کی د٘رِسٹِ سدا سُکھُ ہۄءِ ॥2॥
ساجنُ میِتُ سکھا کرِ ایکُ ॥
ہرِ ہرِ اکھر من مہِ لیکھُ ॥3॥
روِ رہِیا سربت سُیامی ॥
گُݨ گاوےَ نانکُ انّترجامی ॥4॥ 62 ॥ 131 ॥
گئُڑی محلا 5॥
بھےَ مہِ رچِئۄ سبھُ سنّسارا ॥
تِسُ بھءُ ناہی جِسُ نامُ ادھارا ॥1॥
بھءُ ن وِیاپےَ تیری سرݨا ॥
جۄ تُدھُ بھاوےَ سۄئی کرݨا ॥1॥ رہاءُ ॥
سۄگ ہرکھ مہِ آوݨ جاݨا ॥
تِنِ سُکھُ پائِیا جۄ پ٘ربھ بھاݨا ॥2॥
اگنِ ساگرُ مہا وِیاپےَ مائِیا ॥
سے سیِتل جِن ستِگُرُ پائِیا ॥3॥
راکھِ لےءِ پ٘ربھُ راکھنہارا ॥
کہُ نانک کِیا جنّت وِچارا ۔ ॥4॥ 63 ॥ 132 ॥
گئُڑی محلا 5॥
تُمری ک٘رِپا تے جپیِۓَ ناءُ ॥
تُمری ک٘رِپا تے درگہ تھاءُ ॥1॥
تُجھ بِنُ پارب٘رہم نہی کۄءِ ॥
تُمری ک٘رِپا تے سدا سُکھُ ہۄءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
تُم منِ وسے تءُ دۄُکھُ ن لاگےَ ॥
تُمری ک٘رِپا تے بھ٘رمُ بھءُ بھاگےَ ॥2॥
پارب٘رہم اپرنّپر سُیامی ۔ ॥
سگل گھٹا کے انّترجامی ۔ ॥3॥
کرءُ عرداسِ اپنے ستِگُر پاسِ ॥
نانک نامُ مِلےَ سچُ راسِ ॥4॥ 64 ॥ 133 ॥
گئُڑی محلا 5॥
کݨ بِنا جیَسے تھۄتھر تُکھا ॥
نام بِہۄُن سۄُنے سے مُکھا ॥1॥
ہرِ ہرِ نامُ جپہُ نِت پ٘راݨی ۔ ॥
نام بِہۄُن دھ٘رِگُ دیہ بِگانی ॥1॥ رہاءُ ॥
نام بِنا ناہی مُکھِ بھاگُ ॥
بھرت بِہۄُن کہا سۄہاگُ ۔ ॥2॥
نامُ بِسارِ لگےَ ان سُیاءِ ॥
تا کی آس ن پۄُجےَ کاءِ ॥3॥
کرِ کِرپا پ٘ربھ اپنی داتِ ॥
نانک نامُ جپےَ دِن راتِ ॥4॥ 65 ॥ 134 ॥
اپنے ذہن میں گرو کا کلام رکھیں ۔ محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد کرتے ہوئے تمام خدشات دور جاتے ہیں. خدا کے علاوہ ، مخلوق کی حمایت کرنے کے لئے کوئی اور نہیں ہے. وہ اکیلا واحد ہے ، جو مخلوق کو خارج کرتا یا تحفظ دیتا ہے ۔ اپنے دل میں گرو کے نرمل الفاظ کو انروضہ. محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد رکھیں ، اور دنیاوی خواہشات کی آگ سمندر بھر میں تیر. | گرو کے کلام پر اپنی توجہ مرکوز کریں. یہاں (دنیا میں) اور آخرت (خدا کی عدالت) ، آپ کو عزت دی جائے گی. چھوڑنے سب کچھ, گرو کے مقدس کے لئے آتا ہے جو ایک. اے نانک ، ان کے تمام خدشات ختم ہو گئے ہیں اور وہ خوشی حاصل کرتے ہیں. یاد رکھو کہ خدا ، جس کو یاد کر کے تمام گمراہ دور جائیں ، اور اس کے زیور کی طرح قیمتی نام دل میں رہنے کے لئے آتا ہے. اے میرے ذہن میں ، محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کے کلام پر غور کرنا ، جس سے مقدس لوگ خدا کی حمد کرتے ہیں ۔ ایک خدا کے علاوہ بالکل نہیں ہے. جس سے فضل کی نظر میں ابدی سکون حاصل ہو جاتا ہے ۔ خُدا کو اپنے دوست ، ساتھی اور معتمد کے طور پر بنا ، اور اپنے دماغ میں اُس کا مزار بنائیں ۔ اور نانک کو اس باطنی علم کی تعریف کرتا ہے ۔ تمام دنیا خوف میں مصروف رہے ہے. صرف اس شخص کو کوئی خوف نہیں ہے ، جو خدا کی حمایت ہے. اے خُدا ، کوئی خوف اُس شخص کو پہنچتی جو تیری پناہ کے لیے چاہتا ہے ، کیونکہ ایسا کوئی ایسا فرد ہے جو تجھے خوش کرتا ہے ۔ جو درد اور خوشی سے متاثر رہتا ہے وہ پیدائش اور موت کے دور میں رہتا ہے ۔ ایک جو خدا سے خوش ہے ، امن مل جاتا ہے. یہ دنیا آگ کے سمندر کی طرح ہے ، جہاں دنیاوی خوشی کی خواہش انسانوں کے ذہنوں کو چھائی رکھتا ہے. یہ صرف خدا ، نجات دہندہ ہے ، جو انسانوں کو دنیا کی برائیوں سے بچاتا ہے. نانک کہتے ہیں کہ ان انسانوں کی کیا لاچار ہیں ؟ اے خدا ، یہ صرف آپ کے فضل سے ہے کہ ہم آپ کے نام پر مراقبہ کر سکتے ہیں ۔ یہ آپ کے فضل سے ہے کہ ہم آپ کی عدالت میں عزت حاصل کر سکتے ہیں. اے سپریم خدا ، آپ کے علاوہ ، کوئی اور نہیں ہے. تیرے فضل سے ، ابدی سکون حاصل ہو رہا ہے ۔ اگر آپ من میں رہتے ہیں ، تو ہم غم میں مبتلا نہیں ہوتے ۔ آپ کے فضل سے ، شک اور خوف دور ہو جاتا ہے. اے ‘ سپریم خدا ، اے لا ماسٹر ، آپ سب ذہنوں کی اندرونی جاننے والے ہیں ۔ میں نے اپنے سچے گرو سے پہلے یہ دعا کرتے ہیں: یہ ، میں نانک ، خدا کے نام کے خزانے سے نوازا جا سکتا ہے. جیسے بکل اناج کے بغیر خالی ہے ، اسی طرح خدا کے نام کے بغیر منہ خالی ہے. اے فانی ، ہمیشہ خُدا کے نام سے محبت اور عقیدت کے ساتھ مراقبہ کرتا ہے ، (کیونکہ جب موت آتی ہے) ، نام کے بغیر ، یہ جسم اککورساد سمجھا جاتا ہے ۔ خدا کے نام پر مراقبہ کے بغیر ایک شخص کی قسمت پر کوئی خوش قسمتی نہیں. شوہر کے بغیر, شادی کہاں ہے? بالکل اسی طرح دولہا کے بغیر کوئی خوشی سے شادی کی زندگی ہو سکتا ہے. نام کو بھول ، جو کسی دوسرے کی سرگرمیوں میں مصروف ہے ، ان کی خواہشات میں سے کوئی بھی پورا نہیں ہے. جس پر خدا رحم کرنے والا اور نام کا تحفہ رکھے ہے ۔ اے ‘ نانک, وہ ہمیشہ محبت اور عقیدت کے ساتھ آپ کے نام پر یاد.

گئُڑی محلا 5॥
تۄُنّ سمرتھُ تۄُنّہےَ میرا سُیامی ॥
سبھُ کِچھُ تُم تے تۄُنّ انّترجامی ॥1॥
پارب٘رہم پۄُرن جن اۄٹ ॥
تیری سرݨِ اُدھرہِ جن کۄٹِ ॥1॥ رہاءُ ॥
جیتے جیء تیتے سبھِ تیرے ॥
تُمری ک٘رِپا تے سۄُکھ گھنیرے ॥2॥
جۄ کِچھُ ورتےَ سبھ تیرا بھاݨا ॥
حُکمُ بۄُجھےَ سۄ سچِ سماݨا ॥3॥
کرِ کِرپا دیِجےَ پ٘ربھ دانُ ॥
نانک سِمرےَ نامُ نِدھانُ ॥4॥ 66 ॥ 135 ॥
گئُڑی محلا 5॥
تا کا درسُ پائیِۓَ وڈبھاگی ॥
جا کی رام نامِ لِو لاگی ॥1॥
جا کےَ ہرِ وسِیا من ماہی ॥
تا کءُ دُکھُ سُپنےَ بھی ناہی ॥1॥ رہاءُ ॥
سرب نِدھان راکھے جن ماہِ ॥
تا کےَ سنّگِ کِلوِکھ دُکھ جاہِ ॥2॥
جن کی مہِما کتھی ن جاءِ ॥
پارب٘رہمُ جنُ رہِیا سماءِ ॥3॥
کرِ کِرپا پ٘ربھ بِنءُ سُنیِجےَ ॥
داس کی دھۄُرِ نانک کءُ دیِجےَ ॥4॥ 67 ॥ 136 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ہرِ سِمرت تیری جاءِ بلاءِ ॥
سرب کلِیاݨ وسےَ منِ آءِ ॥1॥
بھجُ من میرے ایکۄ نام ॥
جیء تیرے کےَ آوےَ کام ॥1॥ رہاءُ ॥
ریَݨِ دِنسُ گُݨ گاءُ اننّتا ॥
گُر پۄُرے کا نِرمل منّتا ॥2॥
چھۄڈِ اُپاو ایک ٹیک راکھُ ॥
مہا پدارتھُ انّم٘رِت رسُ چاکھُ ॥3॥
بِکھم ساگرُ تیئی جن ترے ॥
نانک جا کءُ ندرِ کرے ॥4॥ 68 ॥ 137 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ہِردےَ چرن کمل پ٘ربھ دھارے ॥
پۄُرے ستِگُر مِلِ نِستارے ॥1॥
گۄوِنّد گُݨ گاوہُ میرے بھائی ۔ ॥
مِلِ سادھۄُ ہرِ نامُ دھِیائی ॥1॥ رہاءُ ॥
دُلبھ دیہ ہۄئی پروانُ ॥
ستِگُر تے پائِیا نام نیِشانُ ॥2॥
ہرِ سِمرت پۄُرن پدُ پائِیا ॥
سادھسنّگِ بھےَ بھرم مِٹائِیا ॥3॥
جت کت دیکھءُ تت رہِیا سماءِ ॥
نانک داس ہرِ کی سرݨاءِ ॥4॥ 69 ॥ 138 ॥
گئُڑی محلا 5॥
گُر جی کے درسن کءُ بلِ جاءُ ॥
جپِ جپِ جیِوا ستِگُر ناءُ ॥1॥
پارب٘رہم پۄُرن گُردیو ۔ ॥
کرِ کِرپا لاگءُ تیری سیو ॥1॥ رہاءُ ॥
چرن کمل ہِردےَ اُر دھاری ॥
من تن دھن گُر پ٘ران ادھاری ॥2॥
سپھل جنمُ ہۄوےَ پرواݨُ ॥
گُرُ پارب٘رہمُ نِکٹِ کرِ جاݨُ ॥3॥
سنّت دھۄُرِ پائیِۓَ وڈبھاگی ॥
نانک گُر بھیٹت
ہرِ سِءُ لِو لاگی ॥4॥ 70 ॥ 139 ॥
اے خُدا ، تُو سب طاقتور ہے ، تُو میرا آقا ہے ۔ سب کچھ آپ سے آتا ہے ؛ تو سب ذہنوں سے واقف ہیں اے ‘ تمام وسعت سپریم خدا ، آپ کو آپ کی پناہ کی تلاش کی طرف سے آپ کے تمام عقیدت مند لاکھوں کو بچا لیا گیا ہے کی دنیاوی سمندر سے) محفوظ کر رہے ہیں. اے خُدا ، جیسا کہ دنیا میں بہت سے لوگ موجود ہیں ، وہ سب تیرا ہیں ۔ آپ کے فضل سے ، انسانوں کو ہر قسم کی سہولت حاصل کر رہی ہے ۔ || 2 | | جو کچھ بھی ہوتا ہے ، وہ سب تیری مرضی کے مطابق ہے ۔ وہی جو آپ کے حکم کو سچ میں ضم کرتا سمجھتا ہے. براہِ کرم اپنے فضل ، خُدا ، اور نام کا یہ تحفہ عطا فرما ، نانک پر ، تاکہ تیرے نام کے خزانہ پر مراقبہ نانک ۔ اے میہلاا 5. عظیم خوش قسمتی سے ، اس کے دارسحن کے مبارک خواب کو حاصل کیا جاتا ہے ، یہ صرف خوش قسمتی سے ہے کہ ایک ایسے شخص کی نظر رکھتا ہے ، اُن کی طرف سے جو پیار خُداوند کے نام سے جذب ہوتے ہیں ۔ جس کا من خُدا کے نام سے باخبر ہے جس میں خُدا کا وجود آیا ہے اُس کے پاس وہ درد نہیں ہے ، حتیٰ کہ خوابوں میں بھی ۔ خدا نے اپنی اولاد کے ذہن میں روحانی فضائل کے تمام خزانوں کو رکھ دیا ہے. (اپنی کمپنی میں تمام گناہوں اور خطاؤں کو دور جانا. ایسی عظمت کا جلال بیان نہیں کیا جا سکتا ۔ کیونکہ یہ اوتار خدا کی طرف سے ہے جو ہر جگہ وسعت ہے ۔ اے خُدا ، اپنی رحمت عطا فرما اور میری اِس درخواست کو سُننے کے لیے ، اپنے نانک کی پاؤں (فروتن خدمت) کی خاک سے برکت دے ۔ محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد رکھنا ، آپ کی بدقسمتی دور ہو جائے گا ، اور تمام آرام آپ کے دماغ میں رہنے کے لئے آئے گا. اے ‘ میرے ذہن, ہمیشہ محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کے نام پر مراقبہ. یہ اکیلے خدا کی عدالت میں آپ کی روح کے لئے استعمال کیا جائے گا. کامل گرو کی نرمل کی تعلیمات کے ذریعے ہمیشہ ، لامحدود خدا کی تعریف گانا. دوسری کوششوں کو چھوڑ کر ، اور ایک خدا کی حمایت پر اپنے ایمان کی جگہ لے. اس کے مہکنا جوہر کا ذائقہ (خدا کا نام) ، سب سے بڑا خزانہ ہے. وہ اکیل کے غدار دنیا کے سمندر سے زیادہ پار. اے نانک جس پر خدا نے اپنے فضل کی نظر کو دھتکارنے ۔ وہ جو اپنے دلوں میں خدا کے لوٹس پاؤں (خدا کا نام) ، کامل سچا گرو سے ملاقات ، وہ کے دنیا بھر میں تیرنے. . اے میرے بھائی کائنات کے مالک کے جلال کی تعریف کرتے ہیں ۔ سینٹ (گرو) سے ملاقات ، محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کے نام پر غور. یہ انسانی جسم ، حاصل کرنے کے لئے مشکل ، خدا کی عدالت میں منظور کیا جاتا ہے ، جب ایک حقیقی گرو سے نام کا بینر حاصل کرتا ہے. محبت عقیدت کے ساتھ خدا پر مراقبہ ، سپریم روحانی حیثیت حاصل کی جاتی ہے. مقدس جماعت میں تمام خوف اور شک سے نکل جاتے ہیں. جہاں بھی میں دیکھتا ہوں ، وہاں میں خدا وسعت دیکھتا ہوں ۔ اے نانک ہمیشہ خدا کی پناہ گاہ میں رہتے ہیں ۔ میں اپنے آپ کو معزز گرو کی نظر سے وقف کرتا ہوں ۔ میں نے مسلسل سچے گرو کے الفاظ کو یاد کر کے روحانی طور پر محسوس. اے ‘ میری عظیم خدا ، اے ‘ میرے کامل الہی گرو ، براہِ کرم رحم کو ظاہر فرما تاکہ میں تیری خدمت میں رہ سکوں اور مراقبہ میں اپنے دل کے اندر تیرا لوٹس پاؤں (نرمل الفاظ) ہوں ۔ گرو کا کلام میری زندگی ، دماغ ، جسم اور دولت کی حمایت ہے ۔ آپ کی انسانی پیدائش کا نتیجہ بن جائے گا اور آپ کو خدا کی عدالت میں منظور کیا جائے گا ،-اگر آپ گرو اور خدا کو ہمیشہ آپ کے لئے بہت قریب پیش کرتے ہیں. گرو کے پاؤں کی دھول (گرو کی محبت اور تعلیم) صرف خوش قسمتی سے حاصل کی جاتی ہے.

گئُڑی محلا 5॥
کرےَ دُہکرم دِکھاوےَ ہۄرُ ॥
رام کی درگہ بادھا چۄرُ ॥1॥
رامُ رمےَ سۄئی راماݨا ॥
جلِ تھلِ مہیِئلِ ایکُ سماݨا ॥1॥ رہاءُ ॥
انّترِ بِکھُ مُکھِ انّم٘رِتُ سُݨاوےَ ॥
جم پُرِ بادھا چۄٹا کھاوےَ ॥2॥
انِک پڑدے مہِ کماوےَ وِکار ॥
کھِن مہِ پ٘رگٹ ہۄہِ سنّسار ॥3॥
انّترِ ساچِ نامِ رسِ راتا ॥
نانک تِسُ کِرپالُ بِدھاتا ॥4॥ 71 ॥ 140 ॥
گئُڑی محلا 5॥
رام رنّگُ کدے اُترِ ن جاءِ ॥
گُرُ پۄُرا جِسُ دےءِ بُجھاءِ ॥1॥
ہرِ رنّگِ راتا سۄ منُ ساچا ॥
لال رنّگ پۄُرن پُرکھُ بِدھاتا ॥1॥ رہاءُ ॥
سنّتہ سنّگِ بیَسِ گُن گاءِ ॥
تا کا رنّگُ ن اُترےَ جاءِ ॥2॥
بِنُ ہرِ سِمرن سُکھُ نہی پائِیا ॥
آن رنّگ پھیِکے سبھ مائِیا ॥3॥
گُرِ رنّگے سے بھۓ نِہال ॥
کہُ نانک گُر بھۓ ہےَ دئِیال ॥4॥ 72 ॥ 141 ॥
گئُڑی محلا 5॥
سِمرت سُیامی کِلوِکھ ناسے ॥
سۄُکھ سہج آننّد نِواسے ॥1॥
رام جنا کءُ رام بھرۄسا ॥
نامُ جپت سبھُ مِٹِئۄ انّدیسا ॥1॥ رہاءُ ॥
سادھسنّگِ کچھُ بھءُ ن بھراتی ॥
گُݨ گۄپال گائیِئہِ دِنُ راتی ॥2॥
کرِ کِرپا پ٘ربھ بنّدھن چھۄٹ ॥
چرݨ کمل کی دیِنی اۄٹ ॥3॥
کہُ نانک منِ بھئی پرتیِتِ ॥
نِرمل جسُ پیِوہِ جن نیِتِ ॥4॥ 73 ॥ 142 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ہرِ چرݨی جا کا منُ لاگا ॥
دۄُکھُ دردُ بھ٘رمُ تا کا بھاگا ॥1॥
ہرِ دھن کۄ واپاری پۄُرا ॥
جِسہِ نِوازے سۄ جنُ سۄُرا ॥1॥ رہاءُ ॥
جا کءُ بھۓ ک٘رِپال گُسائی ॥
سے جن لاگے گُر کی پائی ॥2॥
سۄُکھ سہج سانْتِ آننّدا ॥
جپِ جپِ جیِوے پرماننّدا ॥3॥
نام راسِ سادھ سنّگِ کھاٹی ॥
کہُ نانک پ٘ربھِ اپدا کاٹی ॥4॥ 74 ॥ 143 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ہرِ سِمرت سبھِ مِٹہِ کلیس ॥
چرݨ کمل من مہِ پرویس ॥1॥
اُچرہُ رام نامُ لکھ باری ॥
انّم٘رِت رسُ پیِوہُ پ٘ربھ پِیاری ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
سۄُکھ سہج رس مہا اننّدا ॥
جپِ جپِ جیِوے پرماننّدا ॥2॥
کام ک٘رۄدھ لۄبھ مد کھۄۓ ॥
سادھ کےَ سنّگِ کِلبِکھ سبھ دھۄۓ ॥3॥
کرِ کِرپا پ٘ربھ دیِن دئِیالا ۔ ॥
نانک دیِجےَ سادھ روالا ॥4॥ 75 ॥ 144 ॥
جو کوئی خفیہ طور پر برے اعمال کرتا ہے اور دعوی ہے دوسری صورت میں خدا کی عدالت میں وہ پابند ہے اور چور کی طرح سزا دیتا ہے ۔ یہ شخص اکیلا خدا کا بندہ ہے جو محبت خدا کو یاد کرتا ہے ۔ اور جو یقین رکھتا ہے کہ یہ خدا ہے جو تمام پانی ، زمین اور آسمان میں وسعت ہے. اس کا دماغ زہریلا (برائی) کے ارادوں سے بھرا ہوا ہے ، لیکن یوٹارس میٹھی الفاظ. شہر کی موت (روحانی طور پر مردہ) میں پابند ہے ، وہ بہت زیادہ متاثر ہوتا ہے. خفیہ نقاب کے پیچھے چھپا ، اس نے برائی کی کارروائیوں کا ارتکاب کیا ، لیکن یہ برے اعمال ایک فوری طور پر تمام دنیا کو نازل کرتے ہیں. جو کوئی سچا ہے اور خُدا کے نام کی آب سے حواریوں ہے ۔ اے نانک ، خالق اس شخص پر مہربان ہے ۔ خدا کے لئے محبت اور عقیدت کبھی بھی ایک کے ذہن سے نہیں ہے ، جس کو کامل گرو اس سمجھ سے پتہ چلتا ہے. ایک جس کا من خدا کی محبت سے حواریوں ہے وہ سچ ہے ۔ خُدا کے لیے سچی محبت کے ساتھ حواریوں ہونے کے ناطے ، وہ شخص تمام وسعت خالق کا اوتار بن جاتا ہے ۔ وہ شخص جو مقدس جماعت میں خدا کی حمد کرتا ہے ، خدا کے لئے ایسی ابدی محبت کے ساتھ حواریوں ہے جو کبھی نہیں مدھم ہوتا ہے ۔ حقیقی امن خُدا کو پیار اور عقیدت کے ساتھ یاد رکھنے کے بغیر حاصل نہیں ہے ۔ (الہی محبت کے سوا), محبت کے تمام دیگر قسم کے صرف مایا کے مظاہر ہیں اور سیٹھا ہیں (حقیقی امن سے مبرا), وہ لوگ جو گرو کی طرف سے خدا کی محبت کے ساتھ حواریوں ہیں, خوش رہیں. نانک کہتے ہیں کہ گرو ان پر مہربان بن گئے ہیں ۔ محبت کے ساتھ خُدا کے نام پر مراقبہ ، تمام گناہ کی غلطیوں (خدا کی عقیدت مندوں کی) ختم ہو جاتی ہیں ، اور وہ امن ، آسمانی خوشی اور نعمتوں پر قائم رہیں گے ۔ خُدا کے اُس پر اپنے ایمان کو ہمیشہ قائم رکھتے ہیں ۔ محبت کے ساتھ خدا کے نام پر مراقبہ کی طرف سے, وہ تمام خدشات سے آزاد رہتے ہیں. مقدس جماعت میں ، خدا کے عقیدت مندوں کو کسی بھی خوف یا شک سے متاثر نہیں کیا جاتا ہے ، کیونکہ وہ خدا کے دن اور رات کی تعریف کو گانا رکھتے ہیں. اُس کے فضل کو دے کر ، خُدا نے اُن کو دنیاوی غلامی سے رہائی دی ، اور اُن کو اُس کے لوٹس پاؤں کی حمایت عطا کی ہے ۔ نانک کا کہنا ہے کہ عقیدت مندوں کے ذہنوں میں خدا پر مکمل ایمان پیدا ہے. لہذا وہ ہمیشہ خدا کے نام کی امرت سے لطف اندوز رہتے ہیں ، ہر روز اس کی نرمل کی تعریف کرتے ہوئے. جس کا ذہن خدا کے نرمل نام باخبر ہے ، اس کا درد دکھ اور شک دور فلیس. جو شخص خدا کے نام کی دولت میں ٹریڈز کامل ہو جاتا ہے (جس کو کوئی برائی یا ہوس نہیں کر سکتا). جس کو خدا اس دولت سے عزت بخشتا ہے وہ تمام کے خلاف ایک بہادر لڑاکا بن جاتا ہے ۔ وہ فروتن مخلوق جن کے پاس کائنات کا خدا رحم کرتا ہے تو وہ گرو کے پاؤں میں گرے ہیں (گرو کی پناہ میں آتے ہیں) ۔ وہ ہمیشہ امن ، فائدہ ، نعمتوں اور سکون سے لطف اندوز ہوتے ہیں ۔ سپریم نعمتوں کے منبع پر مراقبہ کرکے ، وہ اعلی روحانی زندگی حاصل کرتے ہیں ۔ نانک کا کہنا ہے کہ خدا نے اس شخص کے مصیبتوں کو ہٹا دیا ہے ۔ محبت عقیدت کے ساتھ خدا کے نام پر یاد رکھنے سے تمام مشکلات خاتمہ ہیں. اپنے دماغ میں اپنے لوٹس پاؤں (نرمل سے محبت) کو اپنے ذہن میں رکھیں. اے میرے عزیز (زبان) خُدا کے نام کو پڑھتا ہے ، ہزاروں بار ، اور خُدا کے نام کے مہکنا آب کو ریلاشانگ رکھیں ۔ وہ ہمیشہ امن ، فائدہ ، نعمتوں اور سکون سے لطف اندوز ہوتے ہیں ، جو کہ سپریم نعمتوں کے ماخذ پر مراقبہ کرتے ہیں ، وہ اعلی روحانی زندگی حاصل کرتے ہیں ۔ وہ اپنے تمام کی طرح ہوس ، غصے ، لالچ اور تکبر ، اور مقدس جماعت میں وہ اپنے تمام گناہوں کو دھونا. . اے مہربان مالک ، آپ کی رحمت عطا کرے ، اور گرو کے پاؤں (فروتن خدمت) کے نانک کو برکت دے ۔

گئُڑی محلا 5॥
جِس کا دیِیا پیَنےَ کھاءِ ॥
تِسُ سِءُ آلسُ کِءُ بنےَ ماءِ ۔ ॥1॥
خصمُ بِسارِ آن کنّمِ لاگہِ ॥
کئُڈی بدلے رتنُ تِیاگہِ ॥1॥ رہاءُ ॥
پ٘ربھۄُ تِیاگ لاگت ان لۄبھا ॥
داسِ سلامُ کرت کت سۄبھا ۔ ॥2॥
انّم٘رِت رسُ کھاوہِ کھان پان ॥
جِنِ دیِۓ تِسہِ ن جانہِ سُیان ॥3॥
کہُ نانک ہم لۄُݨ حرامی ॥
بخشِ لیہُ پ٘ربھ انّترجامی ۔ ॥4॥ 76 ॥ 145 ॥
گئُڑی محلا 5॥
پ٘ربھ کے چرن من ماہِ دھِیانُ ॥
سگل تیِرتھ مجن اِسنانُ ॥1॥
ہرِ دِنُ ہرِ سِمرنُ میرے بھائی ۔ ॥
کۄٹِ جنم کی ملُ لہِ جائی ॥1॥ رہاءُ ॥
ہرِ کی کتھا رِد ماہِ بسائی ॥
من بانْچھت سگلے پھل پائی ॥2॥
جیِون مرݨُ جنمُ پروانُ ॥
جا کےَ رِدےَ وسےَ بھگوانُ ॥3॥
کہُ نانک سیئی جن پۄُرے ॥
جِنا پراپتِ سادھۄُ دھۄُرے ॥4॥ 77 ॥ 146 ॥
گئُڑی محلا 5॥
کھادا پیَندا مۄُکرِ پاءِ ॥
تِس نۄ جۄہہِ دۄُت دھرمراءِ ॥1॥
تِسُ سِءُ بیمُکھُ جِنِ جیءُ پِنّڈُ دیِنا ॥
کۄٹِ جنم بھرمہِ بہُ جۄُنا ॥1॥ رہاءُ ॥
ساکت کی ایَسی ہےَ ریِتِ ॥
جۄ کِچھُ کرےَ سگل بِپریِتِ ॥2॥
جیءُ پ٘راݨ جِنِ منُ تنُ دھارِیا ॥
سۄئی ٹھاکُرُ منہُ بِسارِیا ॥3॥
بدھے بِکار لِکھے بہُ کاگر ॥
نانک اُدھرُ ک٘رِپا سُکھ ساگر ॥4॥
پارب٘رہم تیری سرݨاءِ ॥
بنّدھن کاٹِ ترےَ ہرِ ناءِ ॥1॥ رہاءُ دۄُجا ॥ 78 ॥ 147 ॥
گئُڑی محلا 5॥
اپنے لۄبھ کءُ کیِنۄ میِتُ ॥
سگل منۄرتھ مُکتِ پدُ دیِتُ ॥1॥
ایَسا میِتُ کرہُ سبھُ کۄءِ ॥
جا تے بِرتھا کۄءِ ن ہۄءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
اپُنےَ سُیاءِ رِدےَ لےَ دھارِیا ॥
دۄُکھ درد رۄگ سگل بِدارِیا ॥2॥
رسنا گیِدھی بۄلت رام ॥
پۄُرن ہۄۓ سگلے کام ॥3॥
انِک بار نانک بلِہارا ॥
سپھل درسنُ گۄبِنّدُ ہمارا ॥4॥ 79 ॥ 148 ॥
گئُڑی محلا 5॥
کۄٹِ بِگھن ہِرے کھِن ماہِ ॥
ہرِ ہرِ کتھا سادھسنّگِ سُناہِ ॥1॥
پیِوت رام رسُ انّم٘رِت گُݨ جاسُ ॥
جپِ ہرِ چرݨ مِٹی کھُدھِ تاسُ ॥1॥ رہاءُ ॥
سرب کلِیاݨ سُکھ سہج نِدھان ॥
جا کےَ رِدےَ وسہِ بھگوان ॥2॥

اے خدا ، جس پر کسی کو کھانا اور کپڑے کی طرح کی ضرورت ہوتی ہے ، وہ کس طرح ایک سستی کو یاد کر سکتا ہے ، ماں ؟ روگردانی ماسٹر ، وہ جو دوسرے دنیاوی معاملات میں مصروف ہیں ، وہ پیسے کے بدلے میں خدا کے نام کی طرح زیور دے رہے ہیں (اے بشر) چھوڑنے خدا ، آپ دنیاوی دولت کے لئے لالچ سے منسلک ہیں ، آپ کیسے سالوٹانگ کے بندے (دنیاوی دولت ، خدا کی بجائے ، ماسٹر کی طرف سے اعزاز حاصل کر سکتے ہیں ؟ انسان بہت سے امرت کی طرح مزیدار کھانے کی اشیاء اور مشروبات بسم ، لیکن یہ لالچی اور کافر لوگ بھی خدا کو تسلیم نہیں کرتے ، تمام نزیکوں کے فراہم کرنے والے. نانک کہتے ہیں ، اے خُدا ، ہم کافر لوگ ہیں ۔ اے خُدا ، ذہنوں کی جاننے ، براہِ کرم ہمیں مُعاف کر دے ۔ اے میرے دوست ، خدا کے لوٹس پاؤں پر غور کریں (محبت کے ساتھ) آپ کے دماغ میں. یہ حج کی تمام مقدس عبادت گاہوں میں صفائی غسل کی طرح ہے. اے میرے بھائی ہمیشہ محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کو یاد کرتے ہیں ۔ ایسا کرنے سے ، لاکھوں شرح پیدائش میں مصروف گناہوں کی گندگی بند ہو جائے گی. وہ جو اُس کے دل میں خُدا کی تمجید کرنے والا ہے ۔ اس کے ذہن کی ساری خواہشات پوری ہوتی ہیں ۔ پوری زندگی (پیدائش سے موت تک) ایک شخص کی طرف سے خدا کی عدالت میں منظور کیا جاتا ہے ، جن کے دلوں میں خدا رہتا ہے. نانک کہتے ہیں کہ وہ حلیم مخلوق کامل ہیں ، جو گرو کی فروتن خدمت اور تعلیمات کی مٹی سے برکت پاتے ہیں ۔ جو کوئی تسلیم کئے بغیر خدا کی طرف سے کی گئی نعمتیں کا استعمال رکھتا ہے. صادق منصف کے رسول اس کافر شخص پر نظر رکھیں ۔ تم نے اسے یاد نہیں ہے, جس نے آپ کو یہ جسم اور روح دیا ہے,-آپ کئی پرجاتیوں کے ذریعے لاکھوں کی پیدائش کے لئے گھوم پر رکھیں گے. یہ بے اعتقاد بھونکتا (دنیاوی دولت کے نمازى) کا طرز حیات ہے ، کہ جو کچھ بھی یہ کرتا ہے وہ نیک رستے سے بڑھ کر ہے ۔وہ کافر لوگ اس خدا کو جو ان کی روح ، دماغ اور جسم کو رزق فراہم کیا ہے کو ترک کر دیا ہے. اس کے گناہوں نے بہت زیادہ گنا زیادہ ہے کہ یہ کئی کاغذات میں ریکارڈ کر رہے ہیں. “اے خُدا ، امن کے سمندر ، براہِ کرم رحم کو ظاہر کر اور ہمیں ، نانک کی دعائیں سے بچا ۔ اے ‘ سب وسعت خُدا ، جو تیری پناہ کی تلاش کر رہے ہیں ، اُن کی دنیاوی بانڈز کاٹ دی گئی ہیں ۔ خدا کے نام پر مراقبہ کرکے ، وہ کے دنیاوی سمندر سے زیادہ پار ہوئے ہیں ۔ یہاں تک کہ اگر کسی کو اپنے خود غرض مقصد کو پورا کرنے کے لیے خُدا نے ایک دوست بنایا ہے ، تب بھی خُدا اپنی تمام خواہشات کو پورا کرتا ہے اور اُس کو سے نجات کی حالت میں برکت دیتا ہے ۔ اے قوم ، اس طرح کے استاد سے دوستی کرو ، جس کے دروازے سے کوئی بھی خالی ہاتھ نہیں جاتا. کسی بھی شخص ، جو خالص طور پر خود غرض وجہ کے لئے بھی ، دل میں خدا کو دیا ہے. خدا نے اس شخص کے غم ، درد اور بیماری کو تباہ کر دیا ہے. جس شخص کی زبان کو خدا کے نام وغیرہ میں ہاباٹواٹید ہو جاتا ہے

ائُکھدھ منّت٘ر تنّت سبھِ چھارُ ॥
کرݨیَہارُ رِدے مہِ دھارُ ॥3॥
تجِ سبھِ بھرم بھجِئۄ پارب٘رہمُ ॥
کہُ نانک اٹل اِہُ دھرمُ ॥4॥ 80 ॥ 149 ॥
گئُڑی محلا 5॥
کرِ کِرپا بھیٹے گُر سۄئی ॥
تِتُ بلِ رۄگُ ن بِیاپےَ کۄئی ॥1॥
رام رمݨ ترݨ بھےَ ساگر ॥
سرݨِ سۄُر پھارے جم کاگر ॥1॥ رہاءُ ॥
ستِگُرِ منّت٘رُ دیءُ ہرِ نام ॥
اِہ آسر پۄُرن بھۓ کام ॥2॥
جپ تپ سنّجم پۄُری وڈِیائی ॥
گُر کِرپال ہرِ بھۓ سہائی ॥3॥
مان مۄہ کھۄۓ گُرِ بھرم ॥
پیکھُ نانک پسرے پارب٘رہم ॥4॥ 81 ॥ 150 ॥
گئُڑی محلا 5॥
بِکھےَ راج تے انّدھُلا بھاری ॥
دُکھِ لاگےَ رام نامُ چِتاری ॥1॥
تیرے داس کءُ تُہی وڈِیائی ॥
مائِیا مگنُ نرکِ لےَ جائی ॥1॥ رہاءُ ॥
رۄگ گِرست چِتارے ناءُ ॥
بِکھُ ماتے کا ٹھئُر ن ٹھاءُ ॥2॥
چرن کمل سِءُ لاگی پ٘ریِتِ ॥
آن سُکھا نہی آوہِ چیِتِ ॥3॥
سدا سدا سِمرءُ پ٘ربھ سُیامی ॥
مِلُ نانک ہرِ انّترجامی ॥4॥ 82 ॥ 151 ॥
گئُڑی محلا 5॥
آٹھ پہر سنّگی بٹوارے ॥
کرِ کِرپا پ٘ربھِ لۓ نِوارے ॥1॥
ایَسا ہرِ رسُ رمہُ سبھُ کۄءِ ॥
سرب کلا پۄُرن پ٘ربھُ سۄءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
مہا تپتِ ساگر سنّسار ॥
پ٘ربھ کھِن مہِ پارِ اُتارݨہار ॥2॥
انِک بنّدھن تۄرے نہی جاہِ ॥
سِمرت نام مُکتِ پھل پاہِ ॥3॥
اُکتِ سِیانپ اِس تے کچھُ ناہِ ॥
کرِ کِرپا نانک گُݨ گاہِ ॥4॥ 83 ॥ 152 ॥
گئُڑی محلا 5॥
تھاتی پائی ہرِ کۄ نام ॥
بِچرُ سنّسار پۄُرن سبھِ کام ॥1॥
وڈبھاگی ہرِ کیِرتنُ گائیِۓَ ॥
پارب٘رہم تۄُنّ دیہِ ت پائیِۓَ ॥1॥ رہاءُ ॥
ہرِ کے چرݨ ہِردےَ اُرِ دھارِ ॥
بھو ساگرُ چڑِ اُترہِ پارِ ॥2॥
سادھۄُ سنّگُ کرہُ سبھُ کۄءِ ॥
سدا کلِیاݨ پھِرِ دۄُکھُ ن ہۄءِ ॥3॥
پ٘ریم بھگتِ بھجُ گُݨی نِدھانُ ॥
نانک درگہ پائیِۓَ مانُ ॥4॥ 84 ॥ 153 ॥
گئُڑی محلا 5॥
جلِ تھلِ مہیِئلِ پۄُرن ہرِ میِت ॥
بھ٘رم بِنسے گاۓ گُݨ نیِت ॥1॥
اۄُٹھت سۄوت ہرِ سنّگِ پہرۄُیا ॥
جا کےَ سِمرݨِ جم نہی ڈرۄُیا ॥1॥ رہاءُ ॥
چرݨ کمل پ٘ربھ رِدےَ نِواسُ ॥
تمام ادویات اور علاج, منتر اور تنتروں راکھ سے زیادہ کچھ نہیں ہیں. اپنے دل کے اندر خالق کو خداوند کی طرف سے مبارک باد ۔ || 3 | | اپنے تمام شکوک و شبہات کو ترک کر کے ، اور سپریم خُداوند خُدا پر جھولنا ۔ نانک کہتے ہیں کہ دھرم کی یہ راہ ابدی اور غیر متغیر ہے ۔خداوند نے اپنی رحمت عطا کی اور مجھے گرو سے ملنے کی راہنمائی کی ۔ اُس کی قوت سے ، کوئی بیماری مجھے پہنچتی نہیں ۔ || 1 | | خُداوند کو یاد کرتے ہیں ، میں خوفناک دنیا سے زیادہ پار کرتا ہوں ۔ روحانی واریر کے مقدس میں ، موت کے رسول کے اکاؤنٹ کی کتابیں پھاڑ کر رہے ہیں. || 1 | | توقف | | سچا گرو نے مجھے خداوند کے نام کا منتر دیا ہے ۔ اس تعاون سے میری امور کو حل کیا گیا ہے ۔ || 2 | | مراقبہ ، خود نظم و ضبط ، خود کو کنٹرول اور کامل عظمت حاصل کیا گیا جب رحم خُداوند ، گرو ، میری مدد اور مدد بن گئی ۔ || 3 | | نانک ہر جگہ سپریم خُداوند خُدا کو وسعت دیکھتا ہے ۔نابینا تو شیطانی بادشاہ سے بہتر ہے ۔ درد سے قابو پانا ، نابینا آدمی خُداوند کے نام کو پکارتا ہے ۔ || 1 | | مایا کی نشہ دوسروں کو دوزخ کی طرف لے جاتی ہے ۔ || 1 | | توقف | | بیماری کی طرف سے گرایا ، وہ نام پکارتے. لیکن جو لوگ اس کے ساتھ متوالے ہیں وہ گھر نہیں پائیں گے ، باقی جگہ نہیں ۔ | 0 2 | | جو خُداوند کے لوٹس پاؤں سے محبت رکھتا ہے ، اے نانک ، خُداوند سے ملنے ، باطنی جاننے والا ، دلوں کی سیارکہر ۔ ایک دن چوبیس گھنٹے ، ہائی وے ڈاکوؤں میرے صحابہ ہیں. اُس کے فضل کو دینے ، خُدا نے اُن کو دُور کیا ہے ۔ || 1 | | ہر کوئی اس طرح کے رب کے میٹھا نام پر رہنا چاہئے. دنیا سمندر گرم جلتی ہے! دنیا بھر میں منسلک گرم جلتی ہے! ایک فوری طور پر ، خدا ہمیں بچاتا ہے ، اور ہمیں بھر رکھتا ہے. || 2 | | نام کو یاد رکھنا ، خُداوند کا نام ، نجات کا پھل حاصل ہوتا ہے ۔ || 3 | | ہوشیار آلات کی طرف سے ، کچھ بھی نہیں ہو رہا ہے. نانک کو اپنا فضل عطا فرما تاکہ وہ خدا کی راہ گائیں ۔جو خُداوند کے نام کی دولت کو حاصل کرتے ہیں وہ دُنیا میں آزادانہ طور پر حرکت کرتے ہیں ۔ ان کے تمام معاملات حل کیے جاتے ہیں ۔ || 1 | | بہت اچھی خوش قسمتی سے ، رب کی تعریف کی ہے. اے سپریم خُداوند خُدا ، جیسا کہ تُو نے دے ، تاکہ میں حاصل کروں ۔ || 1 | | توقف | | اپنے دل کے اندر خُداوند کے قدموں کو منکرو ۔ ہر کوئی جو سادہ میں شامل ہوتا ہے ، مقدس کی کمپنی ، ابدی امن سے حاصل ہوتا ہے ۔ درد ان سے کوئی زیادہ تکلیف نہیں دیتا ۔ || 3 | | محبت عقیدت کی عبادت کے ساتھ ، اتکرجتا کے خزانہ پر غور. اے نانک تم خداوند کی عدالت میں عزت پائیں گے ۔خُداوند ، ہمارا دوست ، مکمل طور پر پانی ، زمین اور آسمان وسعت ہے ۔ شکوک و شبہات کو مسلسل خُداوند کی شاندار حمد داسپاللاد ہیں ۔ || 1 | | اور سوتے وقت میں جھوٹ بول رہا ہے جبکہ ، رب ہمیشہ آپ کے ساتھ ہے ، آپ کو دیکھ کر ، آپ کے ساتھ ہے. مراقبے میں اسے یاد, موت کے خوف روانہ. || 1 | | توقف | | خدا کے ساتھ دل میں رہنے کے لوٹس پاؤں کے ساتھ ،

سگل دۄُکھ کا ہۄئِیا ناسُ ॥2॥
آسا ماݨُ تاݨُ دھنُ ایک ॥
ساچے ساہ کی من مہِ ٹیک ॥3॥
مہا غریِب جن سادھ اناتھ ॥
نانک پ٘ربھِ راکھے دے ہاتھ ॥4॥ 85 ॥ 154 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ہرِ ہرِ نامِ مجنُ کرِ سۄُچے ॥
کۄٹِ گ٘رہݨ پُنّن پھل مۄُچے ॥1॥ رہاءُ ॥
ہرِ کے چرݨ رِدے مہِ بسے ॥
جنم جنم کے کِلوِکھ نسے ॥1॥
سادھسنّگِ کیِرتن پھلُ پائِیا ॥
جم کا مارگُ د٘رِسٹِ ن آئِیا ॥2॥
من بچ ک٘رم گۄوِنّد ادھارُ ॥
تا تے چھُٹِئۄ بِکھُ سنّسارُ ॥3॥
کرِ کِرپا پ٘ربھِ کیِنۄ اپنا ॥
نانک جاپُ جپے ہرِ جپنا ॥4॥ 86 ॥ 155 ॥
گئُڑی محلا 5॥
پءُ سرݨائی جِنِ ہرِ جاتے ॥
منُ تنُ سیِتلُ چرݨ ہرِ راتے ॥1॥
بھےَ بھنّجن پ٘ربھ منِ ن بساہی ॥
ڈرپت ڈرپت جنم بہُتُ جاہی ॥1॥ رہاءُ ॥
جا کےَ رِدےَ بسِئۄ ہرِ نام ॥
سگل منۄرتھ تا کے پۄُرن کام ॥2॥
جنمُ جرا مِرتُ جِسُ واسِ ॥
سۄ سمرتھُ سِمرِ ساسِ گِراسِ ॥3॥
میِتُ ساجنُ سکھا پ٘ربھُ ایک ॥
نامُ سُیامی کا نانک ٹیک ॥4॥ 87 ॥ 156 ॥
گئُڑی محلا 5॥
باہرِ راکھِئۄ رِدےَ سمالِ ॥
گھرِ آۓ گۄوِنّدُ لےَ نالِ ॥1॥
ہرِ ہرِ نامُ سنّتن کےَ سنّگِ ॥
منُ تنُ راتا رام کےَ رنّگِ ॥1॥ رہاءُ ॥
گُر پرسادی ساگرُ ترِیا ॥
جنم جنم کے کِلوِکھ سبھِ ہِرِیا ॥2॥
سۄبھا سُرتِ نامِ بھگونّتُ ॥
پۄُرے گُر کا نِرمل منّتُ ॥3॥
چرݨ کمل ہِردے مہِ جاپُ ॥
نانکُ پیکھِ جیِوےَ پرتاپُ ॥4॥ 88 ॥ 157 ॥
گئُڑی محلا 5॥
دھنّنُ اِہُ تھانُ گۄوِنّد گُݨ گاۓ ॥
کُسل کھیم پ٘ربھِ آپِ بساۓ ॥1॥ رہاءُ ॥
بِپتِ تہا جہا ہرِ سِمرنُ ناہی ॥
کۄٹِ اننّد جہ ہرِ گُن گاہی ॥2॥
ہرِ بِسرِۓَ دُکھ رۄگ گھنیرے ॥
پ٘ربھ سیوا جمُ لگےَ ن نیرے ॥3॥
سۄ وڈبھاگی نِہچل تھانُ ॥
جہ جپیِۓَ پ٘ربھ کیول نامُ ॥4॥
جہ جائیِۓَ تہ نالِ میرا سُیامی ॥
نانک کءُ مِلِیا انّترجامی ॥4॥ 89 ॥ 158 ॥
گئُڑی محلا 5॥
جۄ پ٘راݨی گۄوِنّدُ دھِیاوےَ ॥
پڑِیا اݨپڑِیا پرم گتِ پاوےَ ॥1॥
سادھۄُ سنّگِ سِمرِ گۄپال ॥
بِنُ ناوےَ جھۄُٹھا دھنُ مالُ ॥1॥ رہاءُ ॥
اس کا سارا دکھ درد ختم ہو جاتا ہے ۔ || 2 | | اُس کے لیے ، خُدا اُس کی واحد اُمید ، عزت ، مدد اور دولت ہے ۔ خود مختار خدا اپنے دماغ کی صرف حمایت ہے. || 3 | | غریب ، لاچار ، عقیدت مند اور مقدسین قادرِ مطلق خُدا کی طرف سے محفوظ ہیں ، اے ‘ نانک ۔ وہ جو خدا کے نرمل نام میں غسل کی طرف سے خالص ہو گئے ہیں, لاکھوں گرہن کے دوران سب سے زیادہ نیک اعمال کے ثواب سے زیادہ انعام حاصل کیا ہے. || 1 | | توقف | | جس کے دل میں ایک خدا کے نرمل کا نام ، اس کی بے شمار پیدائش کی اس کے گنہگار غلطیوں خاتمہ ہیں | | 1 | | جو خدا کی طرف سے پاک جماعت میں اس کی تعریف کرنے کے ثواب سے نوازا جاتا ہے ، اس میں موت کے خوف کا سامنا نہیں کرنا پڑا | | 2 | | جس نے خدا کو اپنے ذہن ، الفاظ اور اعمال کی صرف حمایت کے طور پر بنایا ہے ، مایا کے زہریلی دنیاوی بانڈز سے نجات پا رہا ہے | | 3 | | اُس کی رحمت کو فیصلے ، جس کو خُدا نے اپنے طور پر بنایا ہے ، اے نانک ، اُس شخص کو خُدا کے نام پر ہمیشہ پیار یاد ۔را گاوری ، پانچویں گرو: پہلے ہی خدا کو احساس ہوا ہے جو ایک کی پناہ گاہ کی تلاش. حواریوں خدا کے نرمل نام کے ساتھ دماغ اور جسم پرسکون ہو جاتے ہیں. || 1 | | جو لوگ خدا کے مخرب نہیں کرتے ، ان کے ذہن میں خوف اور خوف کی بے شمار پیدائش کرتے ہیں ۔ || 1 | | توقف | | جس کے ذہن میں خدا کا نام دیا گیا ہے ، اس کی تمام خواہشات پوری ہوتی ہیں اور ان کے تمام کاموں کو پورا کیا جاتا ہے. || 2 | | وہ جس کے ہاتھ ہماری پیدائش ، پرانی عمر ، اور موت ہے ، محبت کو یاد ہے کہ ہر ایک سانس اور نوالہ کے ساتھ تمام طاقتور خدا ہے. || 3 | | واحد خدا ہی ہمارا دوست ، خیرخواہ اور ساتھی ہے ۔ اے ‘ نانک ، اس ماسٹر خدا کا نام ہماری صرف حمایت ہے. جب مقدسین روزانہ کے کام کے لیے جاتے ہیں ، وہ خُدا کو اپنے دِلوں میں اور جب وہ گھر واپس جاتے ہیں ، وہ خُدا کو اُن کے ساتھ لائے ۔ (وہ ہمیشہ خدا کو ان کے دلوں میں موجود رکھنا) | | 1 | | خُدا کا نام ہمیشہ مقدسین کے دلوں میں ہے جو کہ اُن کے ذہنوں اور اجسام خُدا کی محبت کے ساتھ حواریوں ہیں ۔ || 1 | | توقف | | گرو کے فضل کے ذریعے ، (خدا کے نام پر مراقبہ کی طرف سے) سنتوں کے دنیاوی سمندر پر پار ، اور پیدائش کے تمام گناہوں کو تباہ کر دیا جاتا ہے. || 2 | | عزت اور الہی حکمت خدا کے نام کے ذریعے حاصل کی جاتی ہیں یہ کامل گرو کی نرمل منتر (تعلیم) ہے. || 3 | | محبت آپ کے دل میں خدا کے نرمل نام پر غور. نانک ہو تو روحانی زندگی خُدا کے جلال کو آئینہ کر ۔مُبارک اُس شخص کا دِل ہے جو خُدا کی حمد کا گاتی ہے ۔ خدا خود اس دل میں امن اور خوشی رکھے ہے ۔ || 1 | | توقف | | جو کوئی بھی خدا کو یاد نہیں کرتا وہ دکھی رہتا ہے. جو خدا کی حمد کرتا ہے وہ ہمیشہ نعمتوں سے لطف اندوز ہوتا ہے ۔ || 1 | | خدا کو بھول جانا ، ایک ہر قسم کی بیماری اور بیماریوں سے دوچار ہے. نام پر یاد جو ایک شخص کو موت کا خوف نہیں رکھتا ۔ || 2 | | مُبارک ایک شخص کا دِل ہے جو صرف خُدا کے نام پر یاد ہے ۔ || 3 | | جہاں بھی میں جاؤں ، میرا آقا خدا میرے ساتھ ہے ۔ نانک نے دلوں کی اندرونی جاننے سے ملاقات کی ہے ۔وہ بشر جو ہمیشہ خدا پر یاد ہے ، چاہے تعلیم یافتہ ہو یا غیر پڑھ ، روحانی نعمتوں کی سپریم ریاست حاصل کرتا ہے ۔ || 1 | | پاک کی کمپنی میں خدا پر غور کریں. سوائے دولت کا نام ، تمام دنیاوی مال و جائداد غلط ہے اور آخر میں آپ کے ساتھ نہیں ہوگا ۔

رۄُپونّتُ سۄ چتُرُ سِیاݨا ॥
جِنِ جنِ مانِیا پ٘ربھ کا بھاݨا ॥2॥
جگ مہِ آئِیا سۄ پرواݨُ ॥
گھٹِ گھٹِ اپݨا سُیامی جاݨُ ॥3॥
کہُ نانک جا کے پۄُرن بھاگ ॥
ہرِ چرݨی تا کا منُ لاگ ॥4॥ 90 ॥ 159 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ہرِ کے داس سِءُ ساکت نہی سنّگُ ॥
اۄہُ بِکھئی اۄسُ رام کۄ رنّگُ ॥1॥ رہاءُ ॥
من اسوار جیَسے تُری سیِگاری ॥
جِءُ کاپُرکھُ پُچارےَ ناری ॥1॥
بیَل کءُ نیت٘را پاءِ دُہاوےَ ॥
گئۄُ چرِ سِنّگھ پاچھےَ پاوےَ ॥2॥
گاڈر لے کامدھینُ کرِ پۄُجی ॥
سئُدے کءُ دھاوےَ بِنُ پۄُنّجی ॥3॥
نانک رام نامُ جپِ چیِت ॥
سِمرِ سُیامی ہرِ سا میِت ॥4॥ 91 ॥ 160 ॥
گئُڑی محلا 5॥
سا متِ نِرمل کہیِئت دھیِر ॥
رام رسائِݨُ پیِوت بیِر ॥1॥
ہرِ کے چرݨ ہِردےَ کرِ اۄٹ ॥
جنم مرݨ تے ہۄوت چھۄٹ ॥1॥ رہاءُ ॥
سۄ تنُ نِرملُ
جِتُ اُپجےَ ن پاپُ ॥
رام رنّگِ نِرمل پرتاپُ ॥2॥
سادھسنّگِ مِٹِ جات بِکار ॥
سبھ تے اۄُچ ایہۄ اُپکار ॥3॥
پ٘ریم بھگتِ راتے گۄپال ॥
نانک جاچےَ سادھ روال ॥4॥ 92 ॥ 161 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ایَسی پ٘ریِتِ گۄوِنّد سِءُ لاگی ॥
میلِ لۓ پۄُرن وڈبھاگی ॥1॥ رہاءُ ॥
بھرتا پیکھِ بِگسےَ جِءُ ناری ॥
تِءُ ہرِ جنُ جیِوےَ نامُ چِتاری ॥1॥
پۄُت پیکھِ جِءُ جیِوت ماتا ॥
اۄتِ پۄتِ جنُ ہرِ سِءُ راتا ॥2॥
لۄبھی اندُ کرےَ پیکھِ دھنا ॥
جن چرن کمل سِءُ لاگۄ منا ॥3॥
بِسرُ نہی اِکُ تِلُ داتار ۔ ॥
نانک کے پ٘ربھ پ٘ران ادھار ۔ ॥4॥ 93 ॥ 162 ॥
گئُڑی محلا 5॥
رام رسائِݨِ جۄ جن گیِدھے ॥
چرن کمل پ٘ریم بھگتی بیِدھے ॥1॥ رہاءُ ॥
آن رسا دیِسہِ سبھِ چھارُ ॥
نام بِنا نِہپھل سنّسار ॥1॥
انّدھ کۄُپ تے کاڈھے آپِ ॥
گُݨ گۄوِنّد اچرج پرتاپ ॥2॥
وݨِ ت٘رِݨِ ت٘رِبھوݨِ پۄُرن گۄپال ॥
ب٘رہم پسارُ جیء سنّگِ دئِیال ॥3॥
کہُ نانک سا کتھنی سارُ ॥
مانِ لیتُ جِسُ سِرجنہارُ ॥4॥ 94 ॥ 163 ॥
گئُڑی محلا 5॥
نِتپ٘رتِ ناوݨُ رام سرِ کیِجےَ ॥
جھۄلِ مہا رسُ ہرِ انّم٘رِتُ پیِجےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
نِرمل اُدکُ گۄوِنّد کا نام ॥
مجنُ کرت پۄُرن سبھِ کام ॥1॥
وہ اکیلا ہی خوبصورت ، ہوشیار اور عقلمند ہیں ، جو خدا کی مرضی پر ہتھیار ڈال دیتے ہیں ۔ || 2 | | مبارک ہیں وہ اس دنیا میں آنے والا ہے ، اگر وہ اپنے رب کو تسلیم کرتے ہیں اور ہر دل میں مالک ہیں. || 3 | | نانک کا کہنا ہے کہ ، ان کی اچھی قسمت کامل ہے ، اگر وہ اپنے دماغوں کے اندر خداوند کے پاؤں کو پورا کرتے ہیں خُداوند کے خادم بے اعتقاد بھونکتا کے ساتھ وابستہ نہیں ہوتے ۔ ایک نائب کے چنگل میں ہے ، جبکہ دوسرے رب کے ساتھ محبت میں ہے. یہ ایک سجایا ہوا گھوڑے ، یا ایک خوجہ چھوتی ایک عورت پر ایک غیر معمولی رائڈر کی طرح ہو گا. || 1 | | یہ ایک بیل باندھنے اور اسے دودھ کرنے کی کوشش کی طرح ہو گا ، یا ایک شیر کا پیچھا کرنے کے لئے ایک گائے سوار. || 2 | | یہ ایک بھیڑ لے اور بہشتی گائے ، تمام برکات کے بخشنے کے طور پر اس کی عبادت کرنے کی طرح ہو جائے گا; یہ کسی بھی رقم کے بغیر خریداری باہر جانے کی طرح ہو جائے گا. اے نانک ، شعوری طور پر خُداوند کے نام پر مراقبہ کرنا ۔ خُداوند کے آقا ، اپنے بہترین دوست پر یاد ہونے پر مراقبہ کریں ۔ خالص اور مستحکم وہ عقل ہے جو خُداوند کی شاندار جوہر میں پیتا ہے ۔ || 1 | | آپ کے دل میں خداوند کے پاؤں کی حمایت رکھو ، اور آپ کو پیدائش اور موت کے سائیکل سے محفوظ کیا جائے گا. || 1 | | توقف | | خالص وہ جسم ہے جس میں گناہ پیدا نہیں ہوتا ۔ خُداوند کی محبّت سے پاک جلال ہے ۔ || 2 | | سادہ میں ، مقدس کی کمپنی ، کرپشن خاتمہ ہے. یہ سب سے بڑی نعمت ہے. || 3 | | حواریوں کائنات کے رب کے ساتھ محبت کرنے والی عبادت کے ساتھ ، نانک مقدس کے پاؤں کی خاک کے لئے پوچھتا ہے. یہ میری محبت کائنات کے لیے ہے ۔ کامل اچھی قسمت کے ذریعے ، میں اس کے ساتھ متحد ہو گیا ہوں. || 1 | | توقف | | جیسا کہ بیوی نے اپنے شوہر کو آئینہ پر خوش ہے ، چنانچہ خُداوند کے حلیم خادم کو جاپ کے نام سے زندہ کیا جاتا ہے ۔ || 1 | | جب ماں اپنے بیٹے کو دیکھ کر ہے تو خداوند کا فروتن بندہ حواریوں کے ذریعہ اور اس کے ساتھ ہے ۔ || 2 | | جیسا کہ لالچی آدمی اپنے مال آئینہ پر تنبہیہ ہے ، اسی طرح خداوند کے فروتن خادم کی عقل اس کے لوٹس پاؤں سے منسلک ہے ۔ || 3 | | میں آپ کو کبھی نہیں بھول سکتا ہوں ، یہاں تک کہ ایک فوری طور پر ، اے عظیم عطا! نانک کا خُدا اُس کی زندگی کی سانس کی حمایت ہے ۔وہ حلیم مخلوق جو خُداوند کے شاندار جوہر کے عادی ہیں ، خُداوند کے لوٹس پاؤں کی محبت کرنے والی عبادت کے ساتھ چھید ہیں ۔ تمام دیگر خوشیوں راکھ کی طرح نظر آتے ہیں; اس کے نام کے بغیر ، رب کا اسم ، دنیا لاحاصل ہے. || 1 | | وہ خود ہمیں گہری تاریکی سے بچاتا ہے ۔ شاندار اور جلالی کائنات کے خُداوند کی حمد ہیں ۔ || 2 | | جنگل اور میڈیو میں ، اور تمام تین جہانوں میں ، کائنات کے رب وسعت ہے. وسیع خُداوند خُدا تمام مخلوقات پر رحم فرمانے والا ہے ۔ || 3 | | نانک کہتے ہیں کہ ، اکیلے تقریر بہت اچھا ہے ، جو خالق رب کی طرف سے منظور شدہ ہے. ہر روز ، خداوند کے مقدس پول میں اپنا غسل لے لو. خُداوند کی سب سے زیادہ مزیدار ، شاندار مہکنا امرت میں مکس اور مشروب ۔ جہان کے خُداوند کے نام کا پانی نرمل اور خالص ہے ۔ اس میں آپ کی صفائی غسل لے لو, اور آپ کے تمام معاملات حل کیا جائے گا.

سنّتسنّگِ تہ گۄسٹِ ہۄءِ ॥
کۄٹِ جنم کے کِلوِکھ کھۄءِ ॥2॥
سِمرہِ سادھ کرہِ آننّدُ ॥
منِ تنِ روِیا پرماننّدُ ॥3॥
جِسہِ پراپتِ ہرِ چرݨ نِدھان ॥
نانک داس تِسہِ قُربان ॥4॥ 95 ॥ 164 ॥
گئُڑی محلا 5॥
سۄ کِچھُ کرِ جِتُ میَلُ ن لاگےَ ॥
ہرِ کیِرتن مہِ ایہُ منُ جاگےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
ایکۄ سِمرِ ن دۄُجا بھاءُ ॥
سنّتسنّگِ جپِ کیول ناءُ ॥1॥
کرم دھرم نیم ب٘رت پۄُجا ॥
پارب٘رہم بِنُ جانُ ن دۄُجا ॥2॥
تا کی پۄُرن ہۄئی گھال ॥
جا کی پ٘ریِتِ اپُنے پ٘ربھ نالِ ॥3॥
سۄ بیَسنۄ ہےَ اپر اپارُ ॥
کہُ نانک جِنِ تجے بِکار ॥4॥ 96 ॥ 165 ॥
گئُڑی محلا 5॥
جیِوت چھاڈِ جاہِ دیوانے ۔ ॥
مُئِیا اُن تے کۄ ورسانْنے ۔ ॥1॥
سِمرِ گۄوِنّدُ منِ تنِ دھُرِ لِکھِیا ॥
کاہۄُ کاج ن آوت بِکھِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
بِکھےَ ٹھگئُری جِنِ جِنِ کھائی ॥
تا کی ت٘رِسنا کبہۄُنّ ن جائی ॥2॥
دارن دُکھ دُتر سنّسارُ ॥
رام نام بِنُ کیَسے اُترسِ پارِ ۔ ॥3॥
سادھ سنّگِ مِلِ دُءِ کُل سادھِ ॥
رام نام نانک آرادھِ ॥4॥ 97 ॥ 166 ॥
گئُڑی محلا 5॥
غریِبا اُپرِ جِ کھِنّجےَ داڑی ॥
پارب٘رہمِ سا اگنِ مہِ ساڑی ॥1॥
پۄُرا نِیاءُ کرے کرتارُ ॥
اپُنے داس کءُ راکھنہارُ ॥1॥ رہاءُ ॥
آدِ جُگادِ پ٘رگٹِ پرتاپُ ॥
نِنّدکُ مُیا اُپجِ وڈ تاپُ ॥2॥
تِنِ مارِیا جِ رکھےَ ن کۄءِ ॥
آگےَ پاچھےَ منّدی سۄءِ ॥3॥
اپُنے داس راکھےَ کنّٹھِ لاءِ ॥
سرݨِ نانک ہرِ نامُ دھِیاءِ ॥4॥ 98 ॥ 167 ॥
گئُڑی محلا 5॥
محضرُ جھۄُٹھا کیِتۄنُ آپِ ॥
پاپی کءُ لاگا سنّتاپُ ॥1॥
جِسہِ سہائی گۄبِدُ میرا ॥
تِسُ کءُ جمُ نہی آوےَ نیرا ॥1॥ رہاءُ ॥
ساچی درگہ بۄلےَ کۄُڑُ ॥
سِرُ ہاتھ پچھۄڑےَ انّدھا مۄُڑُ ॥2॥
رۄگ بِیاپے کردے پاپ ॥
عدلی ہۄءِ بیَٹھا پ٘ربھُ آپِ ॥3॥
اپن کمائِۓَ آپے بادھے ॥
دربُ گئِیا سبھُ جیء کےَ ساتھےَ ॥4॥
نانک سرنِ پرے دربارِ ॥
راکھی پیَج میرےَ کرتارِ ॥5॥ 99 ॥ 168 ॥
گئُڑی محلا 5॥
جن کی دھۄُرِ من میِٹھ کھٹانی ॥
پۄُربِ کرمِ لِکھِیا دھُرِ پ٘رانی ॥1॥ رہاءُ ॥
سنتوں کے معاشرے میں ، روحانی بات چیت کی جگہ لے. لاکھوں اوتاروں کی گنہگار غلطیاں مٹ جاتی ہیں ۔ || 2 | | مقدس مُقدّس ایکسٹیسی میں یاد میں مراقبہ کرتے ہیں ۔ ان کے دماغ اور لاشیں سپریم ایکسٹیسی میں ڈوب رہے ہیں. || 3 | | غلام نانک وہ لوگ ہیں جنہوں نے خداوند کے پاؤں کا خزانہ حاصل کیا ہے ۔ صرف ایسا کرو ، جس کے ذریعے کوئی گندگی یا آلودگی آپ کے پاس رہیں گے. آپ کے ذہن کو بیدار اور آگاہ رہنے دو ، رب کی تعریف کی ایک تن ٹین گانا. ایک ہی خداوند پر یاد کرنے پر غور کرنا ۔ دوگانگی کے ساتھ محبت میں نہیں ہو. سنتوں کی معاشرے میں ، صرف نام گانا. || 1 | | اچھے اعمال کا کرم ، جو کہ راست زندگی کا دھرم ، مذہبی رسومات ، روزوں اور عبادت کی مشق کرتا ہے ، لیکن یہ خُدا کے علاوہ کسی اور کو نہیں جانتے ۔ || 2 | | وہ جو خدا میں اپنی محبت رکھتے ہیں-ان کے کاموں کو خوشی کے لئے لایا جاتا ہے. || 3 | | غیر معمولی انمول یہ ہے کہ وایشنآو ، وشنو کی نمازى ، جو کہ منحرف کرپشن ہے ۔ وہ آپ کو بھی دیوانہ ہیں جب تم زندہ ہو ۔ جب کوئی مر رہا ہے جب وہ کیا اچھا کر سکتے ہیں? | | 1 | | آپ کے دماغ اور جسم میں کائنات کے رب پر یاد کرنے میں مراقبہ-یہ آپ کی پہلے سے مقرر کردہ قسمت ہے. مایا کا زہر بالکل استعمال نہیں ہوتا ۔ || 1 | | توقف | | وہ لوگ جنہوں نے اس دھوکے کا زہر کھایا ہے ان کی پیاس کبھی نہیں روانہ ہوگی ۔ || 2 | | غدار دنیا سمندر خوفناک درد سے بھرا ہوا ہے. خُداوند کے نام کے بغیر ، کسی کو کیسے پار کر سکتا ہے ؟ | | 3 | | سادہ میں شامل ہونے میں ، مقدس کی کمپنی ، آپ کو یہاں اور آخرت کو بچا لیا جائے گا. اے نانک ، عبادت کرو اور خُداوند کے نام کو پسند کریں ۔ باریش بادشاہ جو غریبوں کو مارا گیا تھا وہ خداوند کے خدا کی طرف سے آگ میں جلایا گیا ہے ۔ || 1 | | خالق حقیقی انصاف کی امیگرایشن ہے ۔ وہ اپنے بندوں میں سے بچانے والا فضل ہے ۔ || 1 | | توقف | | ابتدا میں اور زمانوں میں اُس کا جلال ظاہر ہے ۔ بدگو کو مہلک بخار کے بعد ہی موت ہوئی ۔ || 2 | | وہ ہلاک ہو گیا ہے ، اور کوئی بھی اسے بچا سکتا ہے. یہاں اور آخرت کو اس کی ساکھ بری ہے ۔ || 3 | | خُداوند اپنے بندوں کو اپنے گلے میں ہے ۔ نانک خداوند کے مقدس کی اور نام پر یاد کی کوشش کرتے ہیں ۔ اس یادگار کو خداوند خود کی طرف سے غلط ثابت کیا گیا تھا. گنہگار اب مایوسی میں مبتلا ہے. || 1 | | جو لوگ اپنے آپ کو کائنات کے مالک ہیں ان کی مدد سے موت بھی ان سے رابطہ نہیں کرتا ۔ || 1 | | توقف | | سچی عدالت میں وہ جھوٹ بولتے ہیں ۔ نابینا بیوقوف اپنے ہاتھوں سے اپنا سر ہڑتال کرتے ہیں ۔ || 2 | | پہنچتی کی بیماری جو گناہوں کا ارتکاب کرتے ہیں ۔ خدا خود جج کے طور پر بیٹھتا ہے. || 3 | | ان کے اپنے اعمال کے ذریعے ، وہ پابند اور گیہیں. ان کا سارا مال اپنی جان کے ساتھ چلا گیا ۔ || 4 | | نانک نے خداوند کی عدالت کے مقدس کو لے لیا ۔ میرے خالق نے میرا اعزاز محفوظ کیا ہے ۔ شائستہ لوگوں کے پاؤں کی خاک میرے دماغ کے لئے بہت میٹھا ہے. کامل کرم فانی کی پہلے سے مقرر کردہ مقدر ہے ۔

اہنّبُدھِ من پۄُرِ تھِدھائی ॥
سادھ دھۄُرِ کرِ سُدھ منّجائی ॥1॥
انِک جلا جے دھۄوےَ دیہی ॥
میَلُ ن اُترےَ سُدھُ ن تیہی ॥2॥
ستِگُرُ بھیٹِئۄ سدا ک٘رِپال ॥
ہرِ سِمرِ سِمرِ کاٹِیا بھءُ کال ॥3॥
مُکتِ بھُگتِ جُگتِ ہرِ ناءُ ॥
پ٘ریم بھگتِ نانک گُݨ گاءُ ॥4॥ 100 ॥ 169 ॥
گئُڑی محلا 5॥
جیِون پدوی ہرِ کے داس ॥
جِن مِلِیا آتم پرگاسُ ॥1॥
ہرِ کا سِمرنُ سُنِ من کانی ॥
سُکھُ پاوہِ ہرِ دُیار پرانی ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
آٹھ پہر دھِیائیِۓَ گۄپالُ ॥
نانک درسنُ دیکھِ نِہالُ ॥2॥ 101 ॥ 170 ॥
گئُڑی محلا 5॥
سانْتِ بھئی گُر گۄبِدِ پائی ॥
تاپ پاپ بِنسے میرے بھائی ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
رام نامُ نِت رسن بکھان ॥
بِنسے رۄگ بھۓ کلِیان ॥1॥
پارب٘رہم گُݨ اگم بیِچار ॥
سادھۄُ سنّگمِ ہےَ نِستار ॥2॥
نِرمل گُݨ گاوہُ نِت نیِت ॥
گئی بِیادھِ اُبرے جن میِت ۔ ॥3॥
من بچ ک٘رم پ٘ربھُ اپنا دھِیائی ॥
نانک داس تیری سرݨائی ॥4॥ 102 ॥ 171 ॥
گئُڑی محلا 5॥
نیت٘ر پ٘رگاسُ کیِیا گُردیو ॥
بھرم گۓ پۄُرن بھئی سیو ॥1॥ رہاءُ ॥
سیِتلا تے رکھِیا بِہاری ॥
پارب٘رہم پ٘ربھ کِرپا دھاری ॥1॥
نانک نامُ جپےَ سۄ جیِوےَ ॥
سادھسنّگِ ہرِ انّم٘رِتُ پیِوےَ ॥2॥ 103 ॥ 172 ॥
گئُڑی محلا 5॥
دھنُ اۄہُ مستکُ دھنُ تیرے نیت ॥
دھنُ اۄءِ بھگت جِن تُم سنّگِ ہیت ॥1॥
نام بِنا کیَسے سُکھُ لہیِۓَ ۔ ॥
رسنا رام نام جسُ کہیِۓَ ॥1॥ رہاءُ ॥
تِن اۄُپرِ جائیِۓَ قُرباݨُ ॥
نانک جِنِ جپِیا نِرباݨُ ॥2॥ 104 ॥ 173 ॥
گئُڑی محلا 5॥
تۄُنّہےَ مصلتِ تۄُنّہےَ نالِ ॥
تۄُہےَ راکھہِ سارِ سمالِ ॥1॥
ایَسا رامُ دیِن دُنی سہائی ॥
داس کی پیَج رکھےَ
میرے بھائی ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
آگےَ آپِ اِہُ تھانُ وسِ جا کےَ ॥
آٹھ پہر منُ ہرِ کءُ جاپےَ ॥2॥
پتِ پرواݨُ سچُ نیِشاݨُ ॥
جا کءُ آپِ کرہِ فُرمانُ ॥3॥
آپے داتا آپِ پ٘رتِپالِ ॥
نِت نِت نانک رام نامُ سمالِ ॥4॥ 105 ॥ 174 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ستِگُرُ پۄُرا بھئِیا ک٘رِپالُ ॥
ہِردےَ وسِیا سدا گُپالُ ॥1॥
رامُ روت سد ہی سُکھُ پائِیا ॥
ذہن فخر کے چیکنا گندگی سے بھرا ہوا ہے. پاک کے قدموں کی خاک کے ساتھ ، یہ سکروبباد صاف ہے ۔ || 1 | | جسم پانی کے بوجھ سے دھویا جا سکتا ہے ، لیکن اس کی گندگی نہیں ہٹا دی جاتی ہے ، اور یہ صاف نہیں ہو جاتا ہے. || 2 | | میں نے اپنے سچے گرو سے ملاقات کی ہے جو ہمیشہ رحم فرمانے والا ہے ۔ مراقبہ اور خدا پر یاد کرنے کے لئے میں نے موت کے خوف سے چھٹکارا حاصل کیا ۔ || 3 | | مکش ، خوشیوں اور دنیاوی کامیابی خُداوند کے نام میں ہے ۔ پیارے عقیدت کی عبادت کے ساتھ ، اے نانک ، اُس کی شاندار حمد کرتا ہے ۔ خُداوند کے غلاموں نے زندگی کی بلند ترین حیثیت حاصل کی ۔ ان سے ملاقات ، روح روشن خیال ہے. || 1 | | جو لوگ خُداوند کے دھیانی کے ساتھ اپنے دماغ اور کانوں کے ساتھ سنتے ہیں وہ خُداوند کے دروازے پر امن کے ساتھ برکت پاتے ہیں ۔ || 1 | | توقف | | ایک دن چوبیس گھنٹے ، دنیا کے رب پر مراقبہ. اے نانک ، اپنے دارسحن کے بابرکت رویا پر گھوم ، میں انراپٹوراد ہوں ۔ امن اور سکون آ چکا ہے ۔ گرو ، کائنات کا رب ، اسے لایا ہے. جلنے والے گناہ روانہ ہوئے ، اے میری قسمت کے بہن بھائیوں. || 1 | | توقف | | آپ کی زبان کے ساتھ ، مسلسل رب کے نام کو گانا. بیماری روانہ ہو گی اور آپ کو بچا لیا جائے گا ۔ || 1 | | اتاہ سپریم خُداوند خُدا کے جلالی فضائل پر غور کریں ۔ سادہ میں ، مقدس کی کمپنی ، آپ غلامی نابالغ ہو جائے گا. || 2 | | ہر روز خُدا کے راہ کو گاتے ۔ آپ کا مصیبتوں داسپاللاد جائے گا اور آپ کو بچا لیا جائے گا ، میرا شائستہ دوست. سوچ ، کلام اور عمل میں ، میں اپنے خدا پر مراقبہ کرتا ہوں ۔ غلام نانک آپ کے مقدس کے پاس آیا ہے. الہٰی گرو نے اپنی آنکھیں کھول دی ہیں ۔ داسپاللاد ہے ۔ میری سروس کامیاب رہی ہے. چیچک سے اسے بچا لیا ہے ۔ سپریم خُداوند خُدا نے اپنا فضل عطا کیا ہے ۔ || 1 | | اے نانک ، وہ اکیلا رہتا ہے ، جو خُداوند کے نام کو منتروں ہے ۔ سادہ میں ، مقدس کی کمپنی ، رب کی مہکنا امرت کی گہرائی سے پیتے ہیں. مُبارک ہے وہ پیشانی اور مُبارک وہ آنکھیں ہیں ۔ مبارک ہیں وہ جو آپ کے ساتھ محبت میں ہیں جو عقیدت مند ہیں. || 1 | | نام کے بغیر ، رب کا نام ، کسی کو کس طرح امن تلاش ؟ آپ کی زبان کے ساتھ ، رب کے نام کی تعریف کا گانا. نانک ان لوگوں کے لئے قربانی ہے جو نارواناا کے خُداوند پر غور کرتے ہیں ۔ تُو میرا مشیر ہے ۔ آپ ہمیشہ میرے ساتھ ہیں. آپ کو محفوظ ، حفاظت اور میرے لئے دیکھ بھال. || 1 | | خُداوند ، ہماری مدد اور اُس دنیا میں اور اُس کی تائید ہے ۔ وہ اپنے غلام کے اعزاز کی حفاظت کرتا ہے ، اے میرے لیے قسمت کا بھائی ۔ وہ اکیلا ہی آخرت والا ہے ۔ یہ جگہ ان کی طاقت میں ہے. ایک دن چوبیس گھنٹے ، اے میرے دماغ ، گانا اور خداوند پر غور کرنا ۔ || 2 | | اُس کی عزت کو تسلیم کیا گیا ہے ، اور وہ حقیقی چپراس برداشت کر رہا ہے ۔ خُداوند خود اپنے شاہی احکام کا مسئلہ ہے ۔ || 3 | | وہ خود ہی بخشنے والا ہے ۔ وہ خود پرور ہے ۔ مسلسل ، نانک ، رب کے نام پر رہتا ہے. جب کامل سچا گرو رحیم ہو جاتا ہے تو دنیا کا رب ہمیشہ کے دل میں ہی رہتا ہے ۔ || 1 | | خُداوند پر مراقبہ کر ، میں نے ابدی امن پایا ہے ۔

مئِیا کری پۄُرن ہرِ رائِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
کہُ نانک جا کے پۄُرے بھاگ ॥
ہرِ ہرِ نامُ استھِرُ سۄہاگُ ॥2॥ 106 ॥
گئُڑی محلا 5॥
دھۄتی کھۄلِ وِچھاۓ ہیٹھِ ॥
گردھپ وانْگۄُ لاہے پیٹِ ॥1॥
بِنُ کرتۄُتی مُکتِ ن پائیِۓَ ॥
مُکتِ پدارتھُ نامُ دھِیائیِۓَ ॥1॥ رہاءُ ॥
پۄُجا تِلک کرت اِسناناں ॥
چھُری کاڈھِ لیوےَ ہتھِ دانا ॥2॥
بیدُ پڑےَ مُکھِ میِٹھی باݨی ॥
جیِیا کُہت ن سنّگےَ پراݨی ॥3॥
کہُ نانک جِسُ کِرپا دھارےَ ॥
ہِردا سُدھُ ب٘رہمُ بیِچارےَ ॥4॥ 107 ॥
گئُڑی محلا 5॥
تھِرُ گھرِ بیَسہُ ہرِ جن پِیارے ۔ ॥
ستِگُرِ تُمرے کاج سوارے ॥1॥ رہاءُ ॥
دُسٹ دۄُت پرمیسرِ مارے ॥
جن کی پیَج رکھی کرتارے ॥1॥
بادِشاہ ساہ سبھ وسِ کرِ دیِنے ॥
انّم٘رِت نام مہا رس پیِنے ॥2॥
نِربھءُ ہۄءِ بھجہُ بھگوان ॥
سادھسنّگتِ مِلِ کیِنۄ دانُ ॥3॥
سرݨِ پرے پ٘ربھ انّترجامی ॥
نانک اۄٹ پکری پ٘ربھ سُیامی ॥4॥ 108 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ہرِ سنّگِ راتے بھاہِ ن جلےَ ॥
ہرِ سنّگِ راتے مائِیا نہی چھلےَ ॥
ہرِ سنّگِ راتے نہی ڈۄُبےَ جلا ॥
ہرِ سنّگِ راتے سُپھل پھلا ॥1॥
سبھ بھےَ مِٹہِ تُمارےَ ناءِ ॥
بھیٹت سنّگِ ہرِ ہرِ گُن گاءِ ॥ رہاءُ ॥
ہرِ سنّگِ راتے مِٹےَ سبھ چِنّتا ॥
ہرِ سِءُ سۄ رچےَ
جِسُ سادھ کا منّتا ॥
ہرِ سنّگِ راتے جم کی نہی ت٘راس ॥
ہرِ سنّگِ راتے پۄُرن آس ॥2॥
ہرِ سنّگِ راتے دۄُکھُ ن لاگےَ ॥
ہرِ سنّگِ راتا اندِنُ جاگےَ ॥
ہرِ سنّگِ راتا سہج گھرِ وسےَ ॥
ہرِ سنّگِ راتے بھ٘رمُ بھءُ نسےَ ॥3॥
ہرِ سنّگِ راتے متِ اۄُتم ہۄءِ ॥
ہرِ سنّگِ راتے نِرمل سۄءِ ॥
کہُ نانک تِن کءُ بلِ جائی ॥
جِن کءُ پ٘ربھُ میرا بِسرت ناہی ॥4॥ 109 ॥
گئُڑی محلا 5 ॥
اُدمُ کرت سیِتل من بھۓ ॥
مارگِ چلت سگل دُکھ گۓ ॥
نامُ جپت منِ بھۓ اننّد ॥
رسِ گاۓ گُن پرماننّد ॥1॥
کھیم بھئِیا کُسل گھرِ آۓ ॥
بھیٹت سادھسنّگِ گئی بلاۓ ॥ رہاءُ ॥
نیت٘ر پُنیِت پیکھت ہی درس ॥
دھنِ مستک چرن کمل ہی پرس ॥
گۄبِنّد کی ٹہل سپھل اِہ کانْئِیا ॥
ترجمہ
مطلق بادشاہ ، کامل بادشاہ نے مجھ پر اپنی شفقت کا اظہار کیانانک کہتے ہیں ، جس کا مقدر کامل ہے ،ہمیشہ کے شوہر ، رب ، حار ، حار کے نام پر غور کرتا ہے۔گوری ، پانچواں مہر:وہ اپنا کمر کا کپڑا کھولتا ہے اور اسے اپنے نیچے پھیلا دیتا ہے۔ایک گدھے کی طرح ، وہ جو کچھ اس کے راستے میں آتا ہے نیچے کھٹکتا ہے۔ نیک اعمال کے بغیر آزادی نہیں ملتی۔آزادی کی دولت صرف نام ، نام پر غور کرنے سے حاصل کی جاتی ہےخداوند کا۔وہ عبادت کی تقریبات کرتا ہے ، اپنے اوپر رسمی تلک نشان لگاتا ہے
پیشانی ، اور اس کی رسم صفائی غسل لیتا ہے؛وہ اپنا چاقو نکالتا ہے ، اور چندہ کا مطالبہ کرتا ہے۔ اپنے منہ سے ، وہ میٹھے میوزیکل اقدامات میں ویدوں کی تلاوت کرتا ہے ،اور پھر بھی وہ دوسروں کی جان لینے میں نہیں کتراتا۔ نانک کہتے ہیں ، جب خدا اپنی مہربانی کا مظاہرہ کرتا ہے ،یہاں تک کہ اس کا دل پاک ہوجاتا ہے ، اور وہ خدا کا خیال کرتا ہے۔گوری ، پانچواں مہر:اے رب کے محبوب بندے ، اپنے ہی گھر میں مستقل رہو۔سچے گرو آپ کے سارے معاملات حل کردیں گے۔ماورائے خداوند نے بدکاروں اور برائیوں کو ختم کردیا ہے۔خالق نے اپنے بندے کی عزت محفوظ رکھی ہے۔بادشاہ اور شہنشاہ سب اس کے اقتدار میں ہیں۔وہ امبروزال نام کے سب سے عمدہ جوہر کو گہرائی سے پیتا ہے۔ خداوند خدا کا نڈر ہوکر غور کرو۔پاک صحبت کی کمپنی ، صحبت سنگت میں شامل ہونا ، یہ تحفہ دیا گیا ہے۔نانک خدا کی پناہ گاہ میں داخل ہوا ہے ، جو باطن میں جاننے والا ، تلاش کرنے والا ہےدل وہ خدا ، اپنے پروردگار کی حمایت کو پکڑتا ہے۔ گوری ، پانچواں مہر:جو خداوند سے ملحق ہے اسے آگ میں نہیں جلایا جائے گا۔جو رب سے مطابقت رکھتا ہے ، اسے مایا کی طرف مائل نہیں کیا جائے گا۔جو خداوند سے منسلک ہے وہ پانی میں ڈوبا نہیں جائے گا۔جو خداوند سے مطابقت رکھتا ہے وہ خوشحال اور نتیجہ خیز ہے۔آپ کے نام سے تمام خوف مٹ گئے ہیں۔سنگت ، مقدس جماعت میں شامل ہوکر ، رب ، حار ، ہار کی ستائش کریں۔جو خداوند سے مطابقت رکھتا ہے ، وہ تمام پریشانیوں سے پاک ہے۔جو خداوند سے مطابقت رکھتا ہے ، اس کو منتر مقدس سے نوازا جاتا ہے۔جو خداوند سے مطابقت رکھتا ہے ، وہ موت کے خوف سے پریشان نہیں ہوتا ہے۔جو خداوند سے مطابقت رکھتا ہے ، اپنی تمام امیدوں کو پورا ہوتا دیکھتا ہے۔جو رب سے مطابقت رکھتا ہے ، اسے تکلیف نہیں ہوتی ہے۔جو خداوند سے مطابقت رکھتا ہے ، وہ دن رات جاگتا اور باخبر رہتا ہے۔جو رب سے مطابقت رکھتا ہے ، وہ بدیہی سکون کے گھر میں رہتا ہے۔جو خداوند سے مطابقت رکھتا ہے ، اپنے شکوک و شبہات کو دیکھ کر بھاگ جاتا ہے۔جو خداوند سے مطابقت رکھتا ہے ، اس میں نہایت ہی عمدہ اور بلند مرتبہ عقل ہے۔جو رب سے مطابقت رکھتا ہے ، اس کی خالص اور بے داغ شہرت ہے۔نانک کہتے ہیں ، میں ان لوگوں کے لئے قربانی ہوں جو میرے خدا کو نہیں بھولتے ہیں۔ گوری ، پانچواں مہر:
مخلصانہ کوششوں کے ذریعے ذہن کو پر سکون اور پرسکون بنایا جاتا ہے۔خداوند کی راہ پر چلتے ہوئے ، تمام تکلیف دور ہوجاتے ہیں۔رب کا نام لے کر ذہن مسرت پیدا ہوجاتا ہے۔پروردگار کی تسبیح گاتے ہوئے ، اعزاز حاصل ہوتا ہے۔ چاروں طرف خوشی ہے ، اور میرے گھر میں امن آگیا ہے۔صحبت سنگت میں شامل ہونا ، حضور کی کمپنی ، بدقسمتی ختم ہوگئی۔میری آنکھیں پاک ہوگئیں ، اس کے درشن کے مبارک نظارے کو دیکھ کر۔مبارک ہے پیشانی جو اس کے لوٹس کے پاؤں کو چھوتی ہے۔رب کائنات کے لئے کام کرنا ، جسم پھل دار بنتا ہے۔
سنّت پ٘رسادِ پرم پدُ پائِیا ॥2॥
جن کی کیِنی آپِ سہاءِ ॥
سُکھُ پائِیا لگِ داسہ پاءِ ॥
آپُ گئِیا تا آپہِ بھۓ ॥
ک٘رِپا نِدھان کی سرنی پۓ ॥3॥
جۄ چاہت سۄئی جب پائِیا ॥
تب ڈھۄُنّڈھن کہا کۄ جائِیا ۔ ॥
استھِر بھۓ بسے سُکھ آسن ॥
گُر پ٘رسادِ نانک سُکھ باسن ॥4॥ 110 ॥
گئُڑی محلا 5॥
کۄٹِ مجن کیِنۄ اِسنان ॥
لاکھ ارب کھرب دیِنۄ دانُ ॥
جا منِ وسِئۄ ہرِ کۄ نامُ ॥1॥
سگل پوِت گُن گاءِ گُپال ॥
پاپ مِٹہِ سادھۄُ سرنِ دئِیال ॥ رہاءُ ॥
بہُتُ اُردھ تپ سادھن سادھے ॥
انِک لابھ منۄرتھ لادھے ॥
ہرِ ہرِ نام رسن آرادھے ॥2॥
سِنّم٘رِتِ ساست بید بکھانے ॥
جۄگ گِیان سِدھ سُکھ جانے ॥
نامُ جپت پ٘ربھ سِءُ من مانے ॥3॥
اگادھِ بۄدھِ ہرِ اگم اپارے ॥
نامُ جپت نامُ رِدے بیِچارے ॥
نانک کءُ پ٘ربھ کِرپا دھارے ॥4॥ 111 ॥
گئُڑی م: 5 ॥
سِمرِ سِمرِ سِمرِ سُکھُ پائِیا ॥
چرن کمل گُر رِدےَ بسائِیا ॥1॥
گُر گۄبِنّدُ پارب٘رہمُ پۄُرا ॥
تِسہِ ارادھِ میرا منُ دھیِرا ॥ رہاءُ ॥
اندِنُ جپءُ گُرۄُ گُر نام ॥
تا تے سِدھِ بھۓ سگل کانْم ॥2॥
درسن دیکھِ سیِتل من بھۓ ॥
جنم جنم کے کِلبِکھ گۓ ॥3॥
کہُ نانک کہا بھےَ بھائی ۔ ॥
اپنے سیوک کی آپِ پیَج رکھائی ॥4॥ 112 ॥
گئُڑی محلا 5॥
اپنے سیوک کءُ آپِ سہائی ॥
نِت پ٘رتِپارےَ باپ جیَسے مائی ॥1॥
پ٘ربھ کی سرنِ اُبرےَ سبھ کۄءِ ॥
کرن کراون پۄُرن سچُ سۄءِ ॥ رہاءُ ॥
اب منِ بسِیا کرنیَہارا ॥
بھےَ بِنسے آتم سُکھ سارا ॥2॥
کرِ کِرپا اپنے جن راکھے ॥
جنم جنم کے کِلبِکھ لاتھے ॥3॥
کہنُ ن جاءِ پ٘ربھ کی وڈِیائی ॥
نانک داس سدا سرنائی ॥4॥ 113 ॥
راگُ گئُڑی چیتی محلا 5 دُپدے
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
رام کۄ بلُ پۄُرن بھائی ۔ ॥
تا تے ب٘رِتھا ن بِیاپےَ کائی ॥1॥ رہاءُ ॥
جۄ جۄ چِتوے داسُ ہرِ مائی ۔ ॥
سۄ سۄ کرتا آپِ کرائی ॥1॥
نِنّدک کی پ٘ربھِ پتِ گوائی ॥
نانک ہرِ گُݨ نِربھءُ گائی ॥2॥ 114 ॥
ترجمہ
سنتوں کے فضل سے ، میں نے اعلی مقام حاصل کیا ہےرب اپنے عاجز بندے کی مدد اور مددگار ہے۔مجھے سکون ملا ہے ، اس کے غلاموں کے قدموں میں گرتا ہوں (عاجزی سے پیغام قبول کریں)۔جب خود غرضی ختم ہو جاتی ہے ، تو پھر وہ خود خداوند بن جاتا ہے۔رحمت کے خزانے کی حرمت کو تلاش کریں۔جب کوئی اپنی مطلوبہ کو پا لے (خدا کو تلاش کرتا ہے) ،پھر اسے کہاں جانا پڑے گا؟وہ روحانی طور پر مستحکم اور مستحکم ہیں اور امن میں رہتے ہیں (جو اپنے اندر خدا کو ڈھونڈتے ہیںانہیں)۔گرو کی مہربانی سے ، نانک امن کے گھر میں داخل ہوئے ہیں۔گوری ، پانچواں مہر:لاکھوں رسمی صفائی غسل کرنے کی خوبیاں ،صدقات میں لاکھوں ، اربوں اور کھربوں کا عطیہ یہ سب نام کے ساتھ اپنے دماغ کو بھرنے کے ذریعے حاصل کیے جاتے ہیں۔وہ جو خدا کی تسبیح گاتے ہیں وہ بالکل پاک ہو سکتے ہیں۔قسم اور مقدس سنتوں کی حرمت میں ان کے گناہوں کو مٹا دیا جاتا ہے۔ ہر طرح کے سادگی سے کام کرنے اور نفس ضبط کرنے کا فائدہ۔بھاری منافع کمانا اور کسی کی خواہشیں پوری ہوتی دیکھ کریہ سب محبت اور عقیدت کے ساتھ نام پر غور کرنے سے حاصل کیے جاسکتے ہیں۔سمرائت ، شاسترا اور وید کی تلاوت کرنے کی خوبیاں ،یوگا کی سائنس ، روحانی دانشمندی اور خوشی کا علم معجزاتی روحانی طاقتیں یہ سب دماغ کو سرنڈر کرنے اور نام پر غور کرنے کے ذریعے آتے ہیں۔ناقابل رسائی اور لاتعداد خدا کی حکمت سمجھ سے باہر ہے۔خدا کو یاد کرنا اور ہمارے دلوں میں اس کا نام غور کرنا ،نانک ، خدا نے ہم پر رحم کیا۔ اس حمد میں وہ ان نعمتوں کا بیان کرتا ہے جو انہوں نے خود یاد کر کے حاصل کیا ہےخدامحبت اور عقیدت سے نام پر غور کرتے ہوئے ، مجھے سکون ملا ہے۔میں نے اپنے دل میں بے پایاں مشورے (گرو کے) پر قائم کر رکھے ہیں ۔گرو خود کائنات کا کامل خالق ہے۔اسی پر غور کرنے سے میرے دماغ کو سکون ملا ہے۔ دن اور رات گرو اور نام پر غور کرتے ہیں۔اس طرح میرے تمام کام کامیابی کے ساتھ انجام پائے ہیں۔ گرو کی آشیر باد اور اپنے پیغام کو جذب کرنے سے ، میں خدا کو ہر جگہ دیکھتا ہوں ، میرا دماغپُر امن اور پُرسکون ہوچکا ہے ،اور بےشمار اوتار کی گنہگار غلطیاں ختم ہوگئیں’نانک ، خدا کے حرم میں اور نام پر غور کرنے سے ، میں سب کھو چکا ہوں خوفگرو نے خود اپنے بندے کی عزت محفوظ رکھی ہے۔اس تسبیح میں گرو جی نے اپنے بندوں پر خدا کی عطا کردہ نعمتوں کا بیان کیا ہے۔خدا خود اپنے بندوں کی مدد اور مدد کرتا ہے۔وہ ہمیشہ ان کے والدین کی طرح ان کی پرواہ کرتا ہے۔خدا کی حرمت گاہ میں ، ہر ایک کو بچایا جاتا ہے۔وہ کامل سچا رب ہے ، جو اسباب کا سبب ہے۔ میرا دماغ اب خالق خداوندی میں بسا ہے۔میرے خوف کو دور کیا گیا ہے ، اور میری روح کو انتہائی عمدہ سکون ملا ہے۔خداوند نے اپنا فضل عطا کیا ، اور اپنے عاجز بندے کو بچایا۔بہت سارے اوتار کی گنہگار غلطیاں دھل گئیں۔ خدا کی عظمت بیان نہیں کی جا سکتی۔خادم نانک ہمیشہ کے لئے اس کے حرم میں ہے۔ راگ گوری چاٹی ، پانچواں مہر ، ڈو۔پداس:ایک آفاقی خالق خدا۔ سچے گرو کی مہربانی سے:اے تقدیر کے بہن بھائی ، خداوند کی قدرت آفاقی اور کامل ہے۔تو مجھے کبھی تکلیف نہیں پہنچ سکتی۔ خداوند کا بندہ جو چاہے ، ماں ،خود خالق ہی اس کا سبب بنتا ہے۔خدا غیبت کرنے والوں کو اپنی عزت گنوا دیتا ہے۔نانک نڈر رب کی تسبیح گاتے ہیں۔
گئُڑی محلا 5॥
بھُج بل بیِر ب٘رہم سُکھ ساگر گرت پرت گہِ لیہُ انّگُریِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
س٘رونِ ن سُرتِ نیَن سُنّدر نہی آرت دُیارِ رٹت پِنّگُریِیا ॥1॥
دیِنا ناتھ اناتھ کرُݨا مےَ ساجن میِت پِتا مہتریِیا ۔ ॥
چرن کول ہِردےَ گہِ نانک بھےَ ساگر سنّت پارِ اُتریِیا ॥2॥2॥ 115 ॥
راگُ گئُڑی بیَراگݨِ محلا 5
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
دې گُسائی میِتُلا تۄُنّ سنّگِ ہمارےَ باسُ جیءُ ॥1॥ رہاءُ ॥
تُجھ بِنُ گھری ن جیِونا دھ٘رِگُ رہݨا سنّسارِ ॥
جیء پ٘راݨ سُکھداتِیا نِمکھ نِمکھ بلِہارِ جی ॥1॥
ہست النّبنُ دیہُ پ٘ربھ گرتہُ اُدھرُ گۄپال ۔ ॥
مۄہِ نِرگُن متِ تھۄریِیا تۄُنّ سد ہی دیِن دئِیال ॥2॥
کِیا سُکھ تیرے سنّملا کون بِدھی بیِچار ۔ ॥
سرݨِ سمائی داس ہِت اۄُچے اگم اپار ॥3॥
سگل پدارتھ اسٹ سِدھِ نام مہا رس ماہِ ॥
سُپ٘رسنّن بھۓ کیسوا سے جن ہرِ گُݨ گاہِ ॥4॥
مات پِتا سُت بنّدھپۄ تۄُنّ میرے پ٘راݨ ادھار ॥
سادھسنّگِ نانکُ بھجےَ بِکھُ ترِیا سنّسارُ ॥5॥1॥ 116 ॥
گئُڑی بیَراگݨِ رہۄۓ کے چھنّت کے گھرِ م: 5
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
ہےَ کۄئی رام پِیارۄ گاوےَ ॥
سرب کلِیاݨ سۄُکھ سچُ پاوےَ ॥ رہاءُ ॥
بنُ بنُ کھۄجت پھِرت بیَراگی ॥
بِرلے کاہۄُ ایک لِو لاگی ॥
جِنِ ہرِ پائِیا سے وڈبھاگی ॥1॥
ب٘رہمادِک سنکادِک چاہےَ ॥
جۄگی جتی سِدھ ہرِ آہےَ ॥
جِسہِ پراپتِ سۄ ہرِ گُݨ گاہےَ ॥2॥
تا کی سرݨِ جِن بِسرت ناہی ॥
وڈبھاگی ہرِ سنّت مِلاہی ॥
جنم مرݨ تِہ مۄُلے ناہی ॥3॥
کرِ کِرپا مِلُ پ٘ریِتم پِیارے ۔ ॥
بِنءُ سُنہُ پ٘ربھ اۄُچ اپارے ۔ ॥
نانکُ مانْگتُ نامُ ادھارے ॥4॥1॥ 117 ॥
ترجمہ
گوری ، پانچواں مہر
اے بہادر اور طاقت ور خدا ، بحرِ امن ، میں گڑھے میں گر گیا براہ کرم ، میرا لے جاناہاتھ ۔میرے کان نہیں سنتے ، اور میری آنکھیں خوبصورت نہیں ہیں۔ مجھے ایسی تکلیف ہے۔ میں ایک غریب معذور ، اپنے دروازے پر پکار رہا ہے۔ اے نانک آپ کے کمل کے پیروں کو مضبوطی سے تھامے (آپ کے پیغام کو عاجزی سے قبول کرتے اور نام پر غور کرتے ہوئے) ، آپ کے سنتوں نے خوفناک (دنیاوی) سمندر پار کرلیا ہے۔ (براہ کرم مجھ پر بھی رحم کریں ، اور مجھے بھی پھیر کریں)۔
راگ گوری بائراگان ، پانچواں مہر:ایک آفاقی خالق خدا۔ سچے گرو کی مہربانی سے:اے پیارے خداوند ، میرے بہترین دوست ، براہ کرم ، میرے ساتھ رہیں۔تیرے بغیر ، میں ایک لمحہ کے لئے بھی نہیں جی سکتا ، اور اس دنیا میں میری زندگی ہےملعون اے روح کی زندگی کی روح ، سلامتی عطا کرنے والے ، ہر لمحہ میں آپ کے لئے قربانی ہوں۔ براہ کرم ، خدا ، مجھے اپنے ہاتھ کا سہارا دے۔ اے رب العالمین مجھے اٹھاؤ اور مجھے اس گڑھے سے نکال۔میں بے کار ہوں ، اتنی کم عقل سے۔ آپ ہمیشہ مسکینوں پر رحم کرتے ہیں۔میں آپ کی کیا راحتوں میں رہ سکتا ہوں؟ میں آپ کو کس طرح غور کرسکتا ہوں؟اے اونچی ، ناقابل رسائی اور لاتعداد رب ، تم اپنے بندوں کو محبت کے ساتھ اپنی حرمت گاہ میں جذب کرتے ہو۔تمام دولت ، اور آٹھ معجزاتی روحانی طاقتیں ، نام ، رب کے نام کے ، عمدہ جوہر میں ہیں۔وہ عاجز مخلوق ، جن کے ساتھ خوبصورت بالوں والے رب خوب راضی ہوتے ہیں ، رب کی حمد گاتے ہیں۔آپ میرے ماں ، باپ ، بیٹے اور رشتہ دار ہیں۔ آپ زندگی کی سانسوں کا سہارا ہیں۔ساہت سنگت میں ، حضور کی صحبت ، نانک نے رب کا دھیان کیا ، اور دنیا کے زہریلے سمندری پانی میں تیر لیا۔ گوری بائراگان ، چھینٹس آف ریہوائے ، پانچویں مہر:ایک آفاقی خالق خدا۔ سچے گرو کی مہربانی سے:کیا کوئی ہے جو پیارے رب کا گانا گائے؟یقینا اس سے ساری لذتیں اور راحتیں آئیں گی۔اس کی تلاش میں جنگل میں نکلتا ہے۔لیکن جو لوگ ایک ہی رب سے پیار کرتے ہیں وہ بہت کم ہوتے ہیں۔جو لوگ خداوند کو پاتے ہیں وہ بہت خوش قسمت اور مبارک ہیں۔برہما اور سانک جیسے دیوتا اس کے لئے ترستے ہیں۔یوگی ، برہم اور سدھاس خداوند کے لئے ترستے ہیں۔
جو بہت برکت والا ہے ، خداوند کی حمد گاتا ہے۔ میں ان لوگوں کی پناہ گاہ کو ڈھونڈتا ہوں جنہوں نے اسے فراموش نہیں کیا۔بڑی خوش قسمتی سے ، ایک لارڈ سینٹ سے ملتا ہے۔وہ پیدائش اور موت کے چکر سے مشروط نہیں ہیں۔اپنی رحمت کا مظاہرہ کریں ، اور اے میرے پیارے محبوب ، مجھے آپ سے ملنے کی رہنمائی کریں۔اے بلند و لامحدود خدا ، میری دعا سنو۔نانک آپ کے نام کی تائید کرتا ہے۔
راگُ گئُڑی پۄُربی محلا 5
ایک اونکارستِگُرپ٘رسادِ॥
کون گُن پ٘رانپتِ مِلءُ میری مائی ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
رۄُپ ہیِن بُدھِ بل ہیِنی مۄہِ پردیسنِ دۄُر تے آئی ॥1॥
ناہِن دربُ ن جۄبن ماتی مۄہِ اناتھ کی کرہُ سمائی ॥2॥
کھۄجت کھۄجت بھئی بیَراگنِ پ٘ربھ درسن کءُ ہءُ پھِرت تِسائی ॥3॥
دیِن دئِیال ک٘رِپال پ٘ربھ نانک سادھسنّگِ میری جلنِ بُجھائی ॥4॥1॥ 118 ॥
گئُڑی محلا 5॥
پ٘ربھ مِلبے کءُ پ٘ریِتِ منِ لاگی ॥
پاءِ لگءُ مۄہِ کرءُ بینتی کۄئۄُ سنّتُ مِلےَ بڈبھاگی ॥1॥ رہاءُ ॥
منُ ارپءُ دھنُ راکھءُ آگےَ من کی متِ مۄہِ سگل تِیاگی
جۄ پ٘ربھ کی ہرِ کتھا سُناوےَ اندِنُ پھِرءُ تِسُ پِچھےَ وِراگی
پۄُرب کرم انّکُر جب پ٘رگٹے بھیٹِئۄ پُرکھُ رسِک بیَراگی
مِٹِئۄ انّدھیرُ مِلت ہرِ نانک جنم جنم کی سۄئی جاگی
گئُڑی محلا 5॥
نِکسُ رے پنّکھی سِمرِ ہرِ پانْکھ
مِلِ سادھۄُ سرݨِ گہُ پۄُرن رام رتنُ ہیِئرے سنّگِ راکھُ
بھ٘رم کی کۄُئی ت٘رِسنا رس پنّکج اتِ تیِکھ٘ېݨ مۄہ کی پھاس
کاٹنہار جگت گُر گۄبِد چرن کمل تا کے کرہُ نِواس
کرِ کِرپا گۄبِنّد پ٘ربھ پ٘ریِتم دیِنا ناتھ سُنہُ عرداسِ
کرُ گہِ لیہُ نانک کے سُیامی جیءُ پِنّڈُ سبھُ تُمری راسِ
گئُڑی محلا 5॥
ہرِ پیکھن کءُ سِمرت منُ میرا
آس پِیاسی چِتوءُ دِنُ ریَنی ہےَ کۄئی سنّتُ مِلاوےَ نیرا
سیوا کرءُ داس داسن کی انِک بھانْتِ تِسُ کرءُ نِہۄرا
تُلا دھارِ تۄلے سُکھ سگلے بِنُ ہرِ درس سبھۄ ہی تھۄرا
سنّت پ٘رسادِ گاۓ گُن ساگر جنم جنم کۄ جات بہۄرا ॥
آند سۄُکھ بھیٹت ہرِ نانک جنمُ ک٘رِتارتھُ سپھلُ سویرا ॥2॥4॥ 121 ॥
راگُ گئُڑی پۄُربی محلا 5
ایک اونکارستِگُرپ٘رسادِ॥
کِن بِدھِ مِلےَ گُسائی میرے رام راءِ ۔ ॥
کۄئی ایَسا سنّتُ سہج سُکھداتا مۄہِ مارگُ دےءِ بتائی ॥1॥ رہاءُ ॥
ترجمہ
ایک دائمی خدا جو گرو کے فضل سے معلوم ہوا۔اے میری ماں ، میں کس طرح کی فضیلت زندگی کے مالک سے مل سکتی ہوں ؟میں کسی بھی روحانی حسن کے بغیر ہوں, کسی بھی الوہی علم یا طاقت سے مبرا. میں ایک اجنبی کی طرح ہوں جو دور دراز زمین سے آیا ہے ۔میں امیر یا نوجوان نہیں ہوں. میں ایک یتیم ہوں-براہِ کرم مُجھے اپنے ساتھ متحد کر ۔تلاش, میں ایک رانونکیاٹی بن گئے ہیں, خواہش سے آزاد. میں ارد گرد گھومتے ہیں ، خدا کے دارسحن کے بابرکت نقطہ نظر کے لئے تلاش.خدا مہربان ہے اور حلیم پر مہربان ہے ۔ اے نانک, سادہ میں, مقدس کی کمپنی, خواہش کی آگ بجھتی گیا ہے.میری پیاری سے ملنے کی محبت کی خواہش میرے ذہن میں پیدا ہے.میں اس کے پاؤں کو چھو کر اپنی دعا پیش کرتا ہوں ۔ اگر صرف میں نے سینٹ سے ملنے کے لئے بہت اچھا خوش قسمتی سے تھا.میں نے اپنے دماغ کو اس سے ہتھیار ڈال دیا ۔ میں اس سے پہلے میرا مال رکھتا ہوں. میں نے اپنے خود غرض طریقوں کو مکمل طور پر ترک کیا ۔جو مجھے خداوند خدا کا خطبہ سکھاتا ہے اور دن میں اس کی پیروی کروں گا ۔جب ماضی کے اعمال کے کرم کی نسل انکرت تو میں نے خداوند سے ملاقات کی ۔ وہ انجویر اور رانونکیاٹی دونوں ہیں ۔جب میں خُداوند سے ملا تو میری تاریکی داسپاللاد گئی ۔ اے نانک ، بے شمار اوتاروں کے لیے سو رہی ہونے کے بعد ، میں نے بیدار کیا ہے ۔آو ، اے روح پرندوں ، اور رب کی دھیانی یاد ہے کہ آپ کے پنکھوں ہو.پاک سینٹ سے ملو ، اپنے مقدس کو لے لو ، اور اپنے دل میں موجود خداوند کے کامل زیور رکھیں.اندوشواس اچھی ہے, خوشی کے لئے پیاس مٹی ہے, اور جذباتی منسلک پھسری ہے, تو آپ کی گردن کے ارد گرد تنگ.جو یہ کاٹا جا سکتا ہے وہ دنیا کا گرو ہے ، کائنات کا رب. تو اپنے آپ کو اپنے لوٹس پاؤں میں رہنے دو.اے خُدا ، میرے محبوب ، حلیم کے آقا ، میں تیری رحمت کو عطا فرما ، میری دُعا کو سنو ۔اَے خُداوند اور نانک کے آقا! میرے جسم اور روح سب آپ سے تعلق رکھتے ہیں.
میرا من ییارن سے خُداوند کو دیکھتا ہے ۔میں اس کے بارے میں سوچتا ہوں ، اس کے لئے امید اور پیاس ، دن اور رات ؛ کیا کوئی ایسا سینٹ ہے جو اسے میرے قریب لا سکتا ہے ؟میں اپنے بندوں کے بندوں کی خدمت کرتا ہوں ۔ بہت سے طریقوں سے میں اس کی بھیک مانگتی ہوں ۔ان کو پیمانے پر قائم کرنا ، میں نے تمام آرام اور خوشیوں کو وزن میں لیا ہے ۔ خُداوند کے بابرکت تصور کے بغیر ، وہ سب مکمل طور پر ناکافی ہیں ۔مقدسوں کے فضل سے میں نیکی کے سمندر کی تعریف کرتا ہوں ۔ بے شمار اوتاروں کے بعد ، مجھے جاری کیا گیا ہے.رب سے ملاقات ، نانک نے امن اور خوشی پایا ہے ۔ اُس کی زندگی چھڑایا اور اُس کے لیے خوشحالی صبحیں ہے ۔میں اپنے آقا ، بادشاہ ، کائنات کے رب سے کیسے مل سکتا ہوں ؟کیا کوئی ایسا سینٹ ہے جو اس طرح کی آسمانی امن کو عطا کر سکتا ہے اور مجھے اس کا راستہ دکھاتا ہے ؟

انّترِ الکھُ ن جائی لکھِیا وِچِ پڑدا ہئُمےَ پائی ॥
مائِیا مۄہِ سبھۄ جگُ سۄئِیا
اِہُ بھرمُ کہہُ کِءُ جائی ۔ ॥1॥
ایکا سنّگتِ اِکتُ گ٘رِہِ بستے
مِلِ بات ن کرتے بھائی ۔ ॥
ایک بستُ بِنُ پنّچ دُہیلے
اۄہ بستُ اگۄچر ٹھائی ॥2॥
جِس کا گ٘رِہُ تِنِ دیِیا تالا
کُنّجی گُر سئُپائی ॥
انِک اُپاو کرے نہی پاوےَ
بِنُ ستِگُر سرݨائی ॥3॥
جِن کے بنّدھن کاٹے ستِگُر
تِن سادھسنّگتِ لِو لائی ॥
پنّچ جنا مِلِ منّگلُ گائِیا
ہرِ نانک بھیدُ ن بھائی ॥4॥
میرے رام راءِ
اِن بِدھِ مِلےَ گُسائی ॥
سہجُ بھئِیا بھ٘رمُ کھِن مہِ ناٹھا
مِلِ جۄتی جۄتِ سمائی ॥1॥ رہاءُ دۄُجا ॥1॥ 122 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ایَسۄ پرچءُ پائِئۄ ॥
کری ک٘رِپا دئِیال بیِٹھُلےَ
ستِگُر مُجھہِ بتائِئۄ ॥1॥ رہاءُ ॥
جت کت دیکھءُ تت تت تُم ہی
مۄہِ اِہُ بِسُیاسُ ہۄءِ آئِئۄ ॥
کےَ پہِ کرءُ عرداسِ بینتی
جءُ سُنتۄ ہےَ رگھُرائِئۄ ॥1॥
لہِئۄ سہسا بنّدھن گُرِ تۄرے
تاں سدا سہج سُکھُ پائِئۄ ॥
ہۄݨا سا سۄئی پھُنِ ہۄسی
سُکھُ دُکھُ کہا دِکھائِئۄ ۔ ॥2॥
کھنّڈ ب٘رہمنّڈ کا ایکۄ ٹھاݨا
گُرِ پردا کھۄلِ دِکھائِئۄ ॥
نءُ نِدھِ نامُ نِدھانُ اِک ٹھائی
تءُ باہرِ کیَٹھےَ جائِئۄ ۔ ॥3॥
ایکےَ کنِک انِک بھاتِ ساجی
بہُ پرکار رچائِئۄ ॥
کہُ نانک بھرمُ گُرِ کھۄئی ہےَ
اِو تتےَ تتُ مِلائِئۄ ॥4॥2॥ 123 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ائُدھ گھٹےَ دِنسُ ریَنارے ॥
من گُر مِلِ کاج سوارے ॥1॥ رہاءُ ॥
کرءُ بیننّتی سُنہُ میرے میِتا
سنّت ٹہل کی بیلا ॥
ایِہا کھاٹِ چلہُ ہرِ لاہا
آگےَ بسنُ سُہیلا ॥1॥
اِہُ سنّسارُ بِکارُ سہسے مہِ
ترِئۄ ب٘رہم گِیانی ॥
جِسہِ جگاۓ پیِیاۓ ہرِ رسُ
اکتھ کتھا تِنِ جانی ॥2॥
جا کءُ آۓ سۄئی وِہاجھہُ
ہرِ گُر تے منہِ بسیرا ॥
نِج گھرِ محلُ پاوہُ سُکھ سہجے
بہُرِ ن ہۄئِگۄ پھیرا ॥3॥
انّترجامی پُرکھ بِدھاتے
سردھا من کی پۄُرے ॥
نانکُ داسُ اِہی سُکھُ ماگےَ
مۄ کءُ کرِ سنّتن کی دھۄُرے ॥4॥3॥ 124 ॥
گئُڑی محلا 5॥
راکھُ پِتا پ٘ربھ میرے ۔ ॥
مۄہِ نِرگُنُ سبھ گُن تیرے ॥1॥ رہاءُ ॥
پنّچ بِکھادی ایکُ غریِبا
راکھہُ راکھنہارے ॥
کھیدُ کرہِ ارُ بہُتُ سنّتاوہِ
آئِئۄ سرنِ تُہارے ॥1॥
ترجمہ
غیب والا رب نفس میں گہرا ہے۔ وہ دیکھا نہیں جاسکتا۔ غرور کا پردہ مداخلت کرتا ہےمایا سے جذباتی لگاؤ میں ، ساری دنیا سو رہی ہے۔ مجھے بتاو ، یہ کیسے ہوسکتا ہے؟ک دور کیا جائے؟ ایک دوسرے کے ساتھ ایک ہی گھر میں رہتا ہے ، لیکن وہ بات نہیں کرتے ہیں ایک دوسرے ، تقدیر کے بہن بھائیایک مادہ کے بغیر ، پانچ دکھی ہیں۔ اس مادہ میں ہےناقابل رسائی جگہ اور جس کا گھر یہ ہے ، اس نے اسے لاک کردیا ہے ، اور گرو کو چابی دے دی ہے۔اور خدا نے اس جسم کو تالا لگا دیا ہے ، اور گرو کو اس کی چابی دے دی ہے۔آپ ہر طرح کی کوشش کر سکتے ہیں ، لیکن اس کے بغیر ، اسے حاصل نہیں کیا جاسکتاسچے گرو کی حرمت۔ سچے گرو کے ذریعہ جن کے بندھن ٹوٹ چکے ہیں ، ان کے لئے محبت کو مضبوط بنائیں صحبت سنگت ، صحبت پاک۔خود منتخب ، خود شناس مخلوق ، ایک ساتھ مل کر رب کے خوش کن گانے گاتے ہیں۔ نانک ، اے تقدیر کے بہن بھائی ، ان کے درمیان کوئی فرق نہیں ہےمیرے آقا بادشاہ ، کائنات کے رب ، اس طرح ملتے ہیں۔
آسمانی نعمت ایک دم ہی مل جاتی ہے ، اور شک دور ہوجاتا ہے۔ اس سے ملنے سے ، میرا نور نور میں مل جاتا ہے۔گوری ، پانچواں مہر:میں اس کے ساتھ قریبی ہوں؛اپنے فضل سے ، میرے محبوب نے مجھے سچے گرو کے بارے میں بتایا ہے۔میں جہاں بھی نظر ڈالتا ہوں ، آپ وہاں ہیں۔ میں اس کا مکمل طور پر قائل ہوں۔میں کس سے دعا کروں؟ خداوند خود سب سنتا ہے۔میری بےچینی ختم ہوگئی۔ گرو نے میرے بندھن کو کاٹ ڈالا ، اور مجھے ابدی مل گئی امن جو کچھ ہوگا ، آخر میں ہوگا۔ تو درد اور خوشی کہاں دیکھی جاسکتی ہے؟براعظم اور نظام شمسی ایک رب کی حمایت میں آرام کرتے ہیں۔ گرو نے وہم کا پردہ مٹا دیا ہے ، اور یہ مجھے دکھایا ہے۔خداوند کے نام کی دولت کے نو خزانے اسی جگہ پر ہیں۔ ہمیں اور کہاں جانا چاہئے؟ ایک ہی سونے کو مختلف مضامین میں بنایا گیا ہے۔ بس ، خداوند خلق نے بہت سارے نمونوں کو بنایا ہے۔نانک کہتے ہیں ، گرو نے میرا شک دور کردیا ہے۔ میں نے اپنی روح کو روح کے ساتھ جوڑ دیا ہے۔ گوری ، پانچواں مہر:یہ زندگی دن رات کم ہوتی جارہی ہے۔گرو سے ملاقات ، آپ کے معاملات حل ہوجائیں گے۔ سنو ، میرے دوستو ، میں آپ سے التجا کرتا ہوں: سنتوں کی خدمت کا وقت آگیا ہے!اس دنیا میں ، خداوند کے نام کا نفع کمائیں ، اور اس کے بعد ، آپ سلامتی سے رہیں گے۔
یہ دنیا بدعنوانی اور عداوت کی لپیٹ میں ہے۔ صرف خدا کے جاننے والے ہی نجات پاتے ہیں
وہ لوگ جو رب کی طرف سے اس عمدہ جوہر کو پینے کے لئے بیدار ہوتے ہیں ، وہ خداوند کی بے ساختہ تقریر کو جانتے ہیں۔ اسی چیز کی خریداری کرو جس کے لئے آپ دنیا میں آئے ہیں ، اور گرو کے ذریعہ ، خداوند آپ کے دماغ میں بسے گا۔اپنے اندرونی وجود کے گھر کے اندر ، آپ کو آسانی کے ساتھ رب کی موجودگی کی حویلی حاصل ہوگی۔ آپ کو دوبارہ اوتار کے پہیے میں نہیں رکھا جائے گا۔ اے اندرونی جاننے والے ، دلوں کو ڈھونڈنے والا ، اصلی وجود ، مقدر کا معمار: براہ کرم میرے دماغ کی یہ آرزو پوری کریں۔نانک ، آپ کا غلام ، اس خوشی کی دعا کرتا ہے: مجھے سنتوں کے پاؤں کی دھول بننے دو۔ گوری ، پانچواں مہر:اے میرے باپ خدا ، مجھے بچا۔میں بیکار اور فضیلت والا ہوں۔ تمام خوبیاں آپ کی ہیں۔ پانچ شیطان چور میرے ناقص وجود پر حملہ کر رہے ہیں۔ اے نجات دہندہ ، مجھے بچا۔وہ مجھے اذیت دے رہے ہیں اور اذیت دے رہے ہیں۔ میں آپ کے حرمت کی تلاش میں آیا ہوں۔
کرِ کرِ ہارِئۄ انِک بہُ بھاتی
چھۄڈہِ کتہۄُنّ ناہی ॥
ایک بات سُنِ تاکی اۄٹا
سادھسنّگِ مِٹِ جاہی ॥2॥
کرِ کِرپا سنّت مِلے مۄہِ
تِن تے دھیِرجُ پائِیا ॥
سنّتی منّتُ دیِئۄ مۄہِ نِربھءُ
گُر کا سبدُ کمائِیا ॥3॥
جیِتِ لۓ اۄءِ مہا بِکھادی
سہج سُہیلی باݨی ॥
کہُ نانک منِ بھئِیا پرگاسا
پائِیا پدُ نِرباݨی ॥4॥4॥ 125 ॥
گئُڑی محلا 5॥
اۄہُ ابِناسی رائِیا ॥
نِربھءُ سنّگِ تُمارےَ بستے
اِہُ ڈرنُ کہا تے آئِیا ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
ایک محلِ تۄُنّ ہۄہِ اپھارۄ
ایک محلِ نِمانۄ ॥
ایک محلِ تۄُنّ آپے آپے
ایک محلِ غریِبانۄ ॥1॥
ایک محلِ تۄُنّ پنّڈِتُ بکتا
ایک محلِ کھلُ ہۄتا ॥
ایک محلِ تۄُنّ سبھُ کِچھُ گ٘راہجُ
ایک محلِ کچھۄُ ن لیتا ॥2॥
کاٹھ کی پُتری کہا کرےَ بپُری
کھِلاونہارۄ جانےَ ॥
جیَسا بھیکھُ کراوےَ بازیِگرُ
اۄہُ تیَسۄ ہی ساجُ آنےَ ॥3॥
انِک کۄٹھری بہُتُ بھاتِ کریِیا
آپِ ہۄیا رکھوارا ॥
جیَسے محلِ راکھےَ تیَسے رہنا
کِیا اِہُ کرےَ بِچارا ۔ ॥4॥
جِنِ کِچھُ کیِیا سۄئی جانےَ
جِنِ اِہ سبھ بِدھِ ساجی ॥
کہُ نانک اپرنّپر سُیامی
قیِمتِ اپُنے قاضی ॥5॥5॥ 126 ॥
گئُڑی محلا 5॥
چھۄڈِ چھۄڈِ رے بِکھِیا کے رسۄُیا ॥
اُرجھِ رہِئۄ رے باور گاور
جِءُ کِرکھےَ ہرِیائِئۄ پسۄُیا ॥1॥ رہاءُ ॥
جۄ جانہِ تۄُنّ اپُنے کاجےَ
سۄ سنّگِ ن چالےَ تیرےَ تسۄُیا ॥
ناگۄ آئِئۄ ناگ سِدھاسی
پھیرِ پھِرِئۄ ارُ کالِ گرسۄُیا ॥1॥
پیکھِ پیکھِ رے کسُنّبھ کی لیِلا
راچِ ماچِ تِنہۄُنّ لءُ ہسۄُیا ॥
چھیِجت ڈۄرِ دِنسُ ارُ ریَنی
جیء کۄ کاجُ ن کیِنۄ کچھۄُیا ॥2॥
کرت کرت اِو ہی بِردھانۄ
ہارِئۄ اُکتے تنُ کھیِنسۄُیا ॥
جِءُ مۄہِئۄ اُنِ مۄہنی بالا
اُس تے گھٹےَ ناہی رُچ چسۄُیا ॥3॥
جگُ ایَسا مۄہِ گُرہِ دِکھائِئۄ
تءُ سرݨِ پرِئۄ تجِ گربسۄُیا ॥
مارگُ پ٘ربھ کۄ سنّتِ بتائِئۄ
د٘رِڑی نانک داس بھگتِ ہرِ جسۄُیا ॥4॥6॥ 127 ॥
گئُڑی محلا 5॥
تُجھ بِنُ کونُ ہمارا ۔ ॥
میرے پ٘ریِتم پ٘ران ادھارا ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
انّتر کی بِدھِ تُم ہی جانی
تُم ہی سجن سُہیلے ॥
سرب سُکھا مےَ تُجھ تے پاۓ
میرے ٹھاکُر اگہ اتۄلے ۔ ॥1॥
ترجمہ
ہر طرح کی چیزوں کی کوشش کرتے ہوئے ، میں تھک گیا ہوں ، لیکن پھر بھی ، وہ مجھے تنہا نہیں چھوڑیں گے۔لیکن میں نے سنا ہے کہ ان کو جڑ سے اکھاڑ پھینکا جاسکتا ہے ، ساد سنگت میں ، حضور کی صحبت میں۔ اور اس لئے میں ان کی پناہ گاہ تلاش کرتا ہوںان کی رحمت میں ، سنتوں نے مجھ سے ملاقات کی ، اور ان سے ، مجھے اطمینان ملاسنتوں نے مجھے نڈر رب کا منتر دیا ہے ، اور اب میں گرو کے الفاظ پر عمل کرتا ہوں میں نے اب ان خوفناک بدکاروں کو فتح حاصل کرلی ہے ، اور اب میری تقریر میٹھی اور عمدہ ہےنانک کہتے ہیں ، الٰہی نور میرے دماغ میں آگیا ہے۔ میں نے نروانا کی حالت حاصل کی ہےگوری ، پانچواں مہر:گوری ، پانچویں گرو:وہ ابدی بادشاہ ہے۔نڈر رب تمہارے ساتھ رہے۔ تو یہ خوف کہاں سے آتا ہے؟ایک شخص میں ، آپ مغرور اور مغرور ہیں اور دوسرے میں ، آپ شائستہ اور شائستہ ہیں۔ایک شخص میں ، آپ سب خود ہی ہیں ، اور دوسرے میں ، آپ غریب ہیں۔ایک شخص میں ، آپ ایک پنڈت ، مذہبی اسکالر اور مبلغ ہیں ، اور دوسرے میں ، آپ صرف ایک بیوقوف ہیں۔ایک شخص میں ، آپ ہر چیز پر گرفت کرتے ہیں ، اور دوسرے میں ، آپ کچھ بھی نہیں قبول کرتے ہیں۔غریب لکڑی کی کٹھ پتلی کیا کر سکتی ہے؟ ماسٹر پپیٹیر سب کچھ جانتا ہے۔
جیسا کہ کٹھ پتلی کٹھ پتلی کے کپڑے پہنتا ہے ، اسی طرح کٹھ پتلی ادا کرتا ہے۔ رب نے مختلف وضاحت کے مختلف ایوان بنائے ہیں اور وہ خود ان کی حفاظت کرتا ہے۔جیسا کہ وہ برتن ہے جس میں خداوند روح رکھتا ہے ، اسی طرح رہتا ہے۔ یہ بیچارہ کیا کرسکتا ہے؟وہ جس نے شے کو پیدا کیا ، اسے سمجھتا ہے۔ اس نے یہ سب کچھ بنا ڈالا ہے۔نانک کہتے ہیں ، رب و مالک لاتعداد ہیں۔ وہ تنہا اپنی مخلوق کی قدر سمجھتا ہے۔گوری ، پانچواں مہر:انہیں ترک کردیں – کرپشن کی لذتوں کو ترک کریں
تم ان میں الجھے ہو ، پاگل بیوقوف ، جیسے ہرے کھیتوں میں جانور چر رہا ہو۔جو آپ کو یقین ہے کہ وہ آپ کے کارآمد ثابت ہوگا ، وہ آپ کے ساتھ ایک انچ بھی نہیں جائے گا۔ننگے آپ آئے ، اور ننگے ہو کر چلے جائیں گے۔ آپ پیدائش اور موت کے چکر میں چکر لگائیں گے ، اور آپ موت کے لئے غذا بنیں گے۔ دنیا کے عبوری ڈراموں کو دیکھتے ، دیکھتے ہوئے ، آپ ان میں الجھے ہوئے ہوتے ہیں ، اور آپ خوشی سے ہنستے ہیں۔زندگی کے تار دن اور رات پتلی پہنے ہوئے ہیں ، اور آپ نے اپنی جان کے لئے کچھ نہیں کیااپنے اعمال کر کے ، آپ بوڑھے ہو گئے ہو۔ آپ کی آواز آپ کو ناکام کردیتی ہے ، اور آپ کا جسم کمزور ہوچکا ہےآپ کو جوانی میں مایا نے لالچ میں مبتلا کیا تھا ، اور اس کے لئے آپ کی لگاؤ نہیں ہےکم ، تھوڑا سا۔گرو نے مجھے دکھایا ہے کہ یہ دنیا کا راستہ ہے۔ میں نے ترک کر دیا ہے
فخر کے ساتھ رہتے ہوئے ، اور آپ کی حرمت میں داخل ہوئے۔سینٹ نے مجھے خدا کا راستہ دکھایا ہے۔ غلام نانک نے عقیدت کا مظاہرہ کیا ہےعبادت اور رب کی حمد کرو۔گوری ، پانچواں مہر:
تیرے سوا ، میرا کون ہے؟اے میرے پیارے ، آپ زندگی کی سانسوں کا سہارا ہیں۔ میرے اندرونی وجود کی حالت تم ہی جانتے ہو۔ تم میرے خوبصورت دوست ہو۔اے میرے ناقابل تلافی اور لازوال رب اور آپ کی طرف سے مجھے تمام راحتیں ملتی ہیں
برنِ ن ساکءُ تُمرے رنّگا
گُݨ نِدھان سُکھداتے ۔ ॥
اگم اگۄچر پ٘ربھ ابِناسی
پۄُرے گُر تے جاتے ॥2॥
بھ٘رمُ بھءُ کاٹِ کیِۓ نِہکیول
جب تے ہئُمےَ ماری ॥
جنم مرݨ کۄ چۄُکۄ سہسا
سادھسنّگتِ درساری ॥3॥
چرݨ پکھارِ کرءُ گُر سیوا
بارِ جاءُ لکھ بریِیا ॥
جِہ پ٘رسادِ اِہُ بھئُجلُ ترِیا
جن نانک پ٘رِء سنّگِ مِریِیا ॥4॥7॥ 128 ॥
گئُڑی محلا 5॥
تُجھ بِنُ کونُ ریِجھاوےَ تۄہی ۔ ॥
تیرۄ رۄُپُ سگل دیکھِ مۄہی ॥1॥ رہاءُ ॥
سُرگ پئِیال مِرت بھۄُء منّڈل
سرب سمانۄ ایکےَ اۄہی ॥
سِو سِو کرت سگل کر جۄرہِ
سرب مئِیا ٹھاکُر تیری دۄہی ॥1॥
پتِت پاون ٹھاکُر نامُ تُمرا
سُکھدائی نِرمل سیِتلۄہی ॥
گِیان دھِیان نانک وڈِیائی
سنّت تیرے سِءُ گال گلۄہی ॥2॥8॥ 129 ॥
گئُڑی محلا 5॥
مِلہُ پِیارے جیِیا ۔ ॥
پ٘ربھ کیِیا تُمارا تھیِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
انِک جنم بہُ جۄنی بھ٘رمِیا
بہُرِ بہُرِ دُکھُ پائِیا ॥
تُمری ک٘رِپا تے مانُکھ دیہ پائی ہےَ
دیہُ درسُ ہرِ رائِیا ॥1॥
سۄئی ہۄیا جۄ تِسُ بھاݨا
اورُ ن کِن ہی کیِتا ॥
تُمرےَ بھاݨےَ بھرمِ مۄہِ مۄہِیا
جاگتُ ناہی سۄُتا ॥2॥
بِنءُ سُنہُ تُم پ٘رانپتِ پِیارے
کِرپا نِدھِ دئِیالا ۔ ॥
راکھِ لیہُ پِتا پ٘ربھ میرے
اناتھہ کرِ پ٘رتِپالا ॥3॥
جِس نۄ تُمہِ دِکھائِئۄ درسنُ
سادھسنّگتِ کےَ پاچھےَ ॥
کرِ کِرپا دھۄُرِ دیہُ سنّتن کی
سُکھُ نانکُ اِہُ باچھےَ ॥4॥9॥ 130 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ہءُ تا کےَ بلِہاری ॥
جا کےَ کیول نامُ ادھاری ॥1॥ رہاءُ ॥
مہِما تا کی کیتک گنیِۓَ
جن پارب٘رہم رنّگِ راتے ॥
سۄُکھ سہج آننّد تِنا سنّگِ
اُن سمسرِ اور ن داتے ॥1॥
جگت اُدھارݨ سیئی آۓ
جۄ جن درس پِیاسا ॥
اُن کی سرݨِ پرےَ سۄ ترِیا
سنّتسنّگِ پۄُرن آسا ॥2॥
تا کےَ چرݨِ پرءُ تا جیِوا
جن کےَ سنّگِ نِہالا ॥
بھگتن کی ریݨُ ہۄءِ منُ میرا
ہۄہُ پ٘ربھۄُ کِرپالا ॥3॥
راجُ جۄبنُ اودھ جۄ دیِسےَ
سبھُ کِچھُ جُگ مہِ گھاٹِیا ॥
نامُ نِدھانُ سد نوتنُ نِرملُ
اِہُ نانک ہرِ دھنُ کھاٹِیا ॥4॥ 10 ॥ 131 ॥
ترجمہ
اے سلامتی کے خزانے ، اے مہارت کے خزانے ، میں آپ کے مظاہر بیان نہیں کر سکتا
خدا ناقابلِ رسا ، ناقابل فہم اور ناقابل تلافی ہے۔ اس کے ذریعے جانا جاتا ہےکامل گرو ۔میرا شک اور خوف دور ہوچکا ہے ، اور میں پاک ہو گیا ہوں ، جب سے میراانا فتح ہوا۔میرا پیدائشی اور موت کا خوف ختم ہو گیا ہے ، آپ کا مبارک بصیرت دیکھنے میں صحبت سنگت ، صحبت پاک۔ میں گرو کے پاؤں دھوتا ہوں اور اس کی خدمت کرتا ہوں۔ میں ایک لاکھ بار اس کے لئے قربانی ہوں۔اپنی مہربانی سے ، خادم نانک نے اس خوفناک دنیا کے سمندر کو پار کیا ہے۔ میں ہوں میرے محبوب کے ساتھ متحد ہوں۔گوری ، پانچواں مہر:آپ کو چھوڑ کر کون آپ کو خوش کر سکتا ہے؟آپ کے خوبصورت فارم پر نگاہ ڈالتے ہوئے ، سبھی داخل ہوجاتے ہیں۔ آسمانی جنت میں ، سیارے کی زمین اور تمام کہکشاؤں میں ، انڈرورلڈ کے قریب علاقوں میں ، ایک ہی رب ہر جگہ پھیل رہا ہے۔”شیوا ، شیوا” کہتے ہوئے ہر شخص آپ کی ہتھیلیوں کو ایک ساتھ دبائے آپ سے پکارتا ہے۔ اے رحیم خداوند اور مالک ، ہر ایک آپ کی مدد کے لئے پکارتا ہے۔ اے رب ، مالک ، آپ کا نام گنہگاروں کو پاک کرنے والا ، امن دینے والا ، بے عیب ، ٹھنڈا کرنے اور راحت بخش ہے۔نانک ، روحانی دانشمندی ، مراقبہ اور شاندار عظمت آپ کے سنتوں کے ساتھ مکالمہ اور گفتگو سے حاصل ہوتی ہے
گوری ، پانچواں مہر:میرے پیارے محبوب سے مجھ سے ملو۔اے خدا ، جو بھی تم کرو – وہی ہوتا ہے۔ لاتعداد اوتار میں گھومتے پھرتے ، مجھے بار بار بہت ساری زندگیوں میں تکلیف اور تکلیف برداشت ہوتی رہی۔تیرے فضل سے ، میں نے یہ انسانی جسم حاصل کیا۔ اے خداوند بادشاہ ، مجھے اپنے درشن کا بابرکت نظریہ عطا فرماجو اس کی رضا کو راضی کرتا ہے وہ ہوا۔ کوئی دوسرا کچھ نہیں کرسکتا۔آپ کی مرضی سے ، جذباتی لگاؤ کے فریب سے لالچ میں ، لوگ سو رہے ہیں۔ وہ نہیں اٹھتے
براہ کرم ، میری دعا سن ، اے رب حیات ، اے محبوب ، رحم و کرم کا سمندر۔اے میرے باپ خدا ، مجھے بچا۔ میں یتیم ہوں – براہ کرم ، مجھے پسند کیج آپ نے ساد سنگت ، مقدس کی صحبت کی خاطر ، اپنے درشن کا بابرکت نظریہ ظاہر کیا۔اپنا فضل عطا فرما ، اور ہمیں اولیاء کے پیروں کی خاک سے نوازے۔ نانک اس امن کے خواہاں ہیں گوری ، پانچواں مہر:میں ان کے لئے قربانی ہوں جو نام کی تائید کرتے ہیں۔ میں ان عاجز انسانوں کی تعریفوں کو کس طرح سن سکتا ہوں جو پروردگار خدا سے محبت کرتے ہیں؟امن ، بدیہی تسکین اور نعمت ان کے ساتھ ہے۔ ان کے برابر کوئی دوسرا دینے والا نہیں ہے۔وہ دنیا کو بچانے آئے ہیں۔ وہ شائستہ انسان جو اپنے بصیرت کے پیاسے ہیں۔جو لوگ ان کی پناہ گاہ کو ڈھونڈتے ہیں وہ پار ہوجاتے ہیں۔ سنتوں کی سوسائٹی میں ، ان کی امیدیں پوری ہوتی ہیں اگر میں ان کے پیروں پر گروں تو میں زندہ ہوں؛ ان عاجز انسانوں کے ساتھ صحبت کر کے ، میں خوش رہتا ہوں۔اے خدا ، مجھ پر مہربانی فرما ، کہ میرا دماغ تیرے عقیدت مندوں کے پیروں کی خاک بن جائےطاقت اور اختیار ، جوانی اور عمر – جو کچھ بھی اس دنیا میں دیکھا جاتا ہے ، وہ سب ختم ہوجائے گا۔نام کا خزانہ ، رب کا نام ، ہمیشہ کے لئے نیا اور تقویت بخش ہے۔ نانک نے رب کی یہ دولت کمائی ہے۔
گئُڑی محلا 5॥
جۄگ جُگتِ سُنِ آئِئۄ گُر تے ॥
مۄ کءُ ستِگُر سبدِ بُجھائِئۄ ॥1॥ رہاءُ ॥
نءُ کھنّڈ پ٘رِتھمی اِسُ تن مہِ روِیا
نِمکھ نِمکھ نمسکارا ॥
دیِکھِیا گُر کی مُنّد٘را کانی
د٘رِڑِئۄ ایکُ نِرنّکارا ॥1॥
پنّچ چیلے مِلِ بھۓ اِکت٘را
ایکسُ کےَ وسِ کیِۓ ॥
دس بیَراگنِ آگِیاکاری
تب نِرمل جۄگی تھیِۓ ॥2॥
بھرمُ جراءِ چرائی بِبھۄُتا
پنّتھُ ایکُ کرِ پیکھِیا ॥
سہج سۄُکھ سۄ کیِنی بھُگتا
جۄ ٹھاکُرِ مستکِ لیکھِیا ॥3॥
جہ بھءُ ناہی تہا آسنُ بادھِئۄ
سِنّگی انہت بانی ॥
تتُ بیِچارُ ڈنّڈا کرِ راکھِئۄ
جُگتِ نامُ منِ بھانی ॥4॥
ایَسا جۄگی وڈبھاگی بھیٹےَ
مائِیا کے بنّدھن کاٹےَ ॥
سیوا پۄُج کرءُ تِسُ مۄُرتِ کی
نانکُ تِسُ پگ چاٹےَ ॥5॥ 11 ॥ 132 ॥
گئُڑی محلا 5॥
انۄُپ پدارتھُ نامُ سُنہُ
سگل دھِیائِلے میِتا ۔ ॥
ہرِ ائُکھدھُ جا کءُ گُرِ دیِیا
تا کے نِرمل چیِتا ॥1॥ رہاءُ ॥
انّدھکارُ مِٹِئۄ تِہ تن تے
گُرِ سبدِ دیِپکُ پرگاسا ॥
بھ٘رم کی جالی تا کی کاٹی
جا کءُ سادھسنّگتِ بِس٘واسا ॥1॥
تاریِلے بھوجلُ تارۄُ بِکھڑا
بۄہِتھ سادھۄُ سنّگا ॥
پۄُرن ہۄئی من کی آسا
گُرُ بھیٹِئۄ ہرِ رنّگا ॥2॥
نام خزانا بھگتی پائِیا
من تن ت٘رِپتِ اگھاۓ ॥
نانک ہرِ جیءُ تا کءُ دیوےَ
جا کءُ حُکمُ مناۓ ॥3॥ 12 ॥ 133 ॥
گئُڑی محلا 5॥
دئِیا مئِیا کرِ پ٘رانپتِ مۄرے
مۄہِ اناتھ سرݨِ پ٘ربھ تۄری ॥
انّدھ کۄُپ مہِ ہاتھ دے راکھہُ
کچھۄُ سِیانپ اُکتِ ن مۄری ॥1॥ رہاءُ ॥
کرن کراون سبھ کِچھُ تُم ہی
تُم سمرتھ ناہی ان ہۄری ॥
تُمری گتِ مِتِ تُم ہی جانی
سے سیوک جِن بھاگ متھۄری ॥1॥
اپُنے سیوک سنّگِ تُم پ٘ربھ راتے
اۄتِ پۄتِ بھگتن سنّگِ جۄری ॥
پ٘رِءُ پ٘رِءُ نامُ تیرا درسنُ چاہےَ
جیَسے د٘رِسٹِ اۄہ چنّد چکۄری ॥
رام سنّت مہِ بھیدُ کِچھُ ناہی
ایکُ جنُ کئی مہِ لاکھ کرۄری ॥
جا کےَ ہیِۓَ پ٘رگٹُ پ٘ربھُ ہۄیا
اندِنُ کیِرتنُ رسن رمۄری ॥3॥
تُم سمرتھ اپار اتِ اۄُچے
سُکھداتے پ٘ربھ پ٘ران ادھۄری ۔ ॥
نانک کءُ پ٘ربھ کیِجےَ کِرپا
اُن سنّتن کےَ سنّگِ سنّگۄری ॥4॥ 13 ॥ 134 ॥
ترجمہ
گوری ، پانچواں مہر:میں یوگا کی راہ سیکھنے کے لئے گرو کے پاس آیا تھا۔سچے گرو نے کلام شبہ کے ذریعہ مجھ پر یہ انکشاف کیا ہے۔وہ دنیا کے نو براعظموں اور اس جسم کے اندر موجود ہے۔ ہر لمحہ ، میں اس کے ساتھ عاجزی کے ساتھ سجدہ کرتا ہوں۔میں نے گورو کی تعلیمات کو اپنے کان کی گھنٹی بنی ہے ، اور میں نے اپنے وجود میں ہی ایک بے نیاز رب کو اپنے اندر بٹھا لیا ہے۔ میں نے پانچوں شاگردوں کو ساتھ لایا ہے ، اور وہ اب ایک ہی ذہن کے زیر کنٹرول ہیں۔جب دس ہرمیت بھگوان کے فرمانبردار ہوجاتے ہیں ، تب میں ایک بے عیب یوگی بن گیا۔ میں نے اپنے شکوک و شبہات کو جلا دیا ہے ، اور اپنے جسم کو راکھ سے بدبودار کردیا ہے۔ میرا راستہ صرف ایک ہی رب کو دیکھنے کے لئے ہے۔میں نے اس بدیہی امن کو اپنا کھانا بنایا ہے۔ لارڈ ماسٹر نے میرے پیشانی پر یہ طے شدہ مقدر لکھا ہے۔ اس جگہ جہاں کہیں خوف نہیں ، میں نے اپنی یوگک کرنسی اختیار کی ہے۔ اس کی بنی کی بے ساختہ راگ میرا سینگ ہے۔میں نے اپنے یوگک عملے کو لازمی حقیقت پر غور کیا ہے۔ میرے ذہن میں نام کی محبت میرا یوگک طرز زندگی ہے۔بڑی خوش قسمتی سے ، اس طرح کے یوگی سے ملاقات ہوتی ہے ، جو مایا کے بندھنوں کو ختم کرتا ہے۔نانک اس حیرت انگیز شخص کی خدمت اور تعبیر کرتا ہے ، اور اس کے پاؤں بوسہ دیتا ہے۔گوری ، پانچواں مہر:نام ، رب کا نام ، ایک لاجواب خوبصورت خزانہ ہے۔ سب دوست سنو اور اس پر غور کرو۔وہ ، جن کو گرو نے رب کی دوائی دی ہے۔ ان کے ذہن پاک و پاکیزہ ہوجاتے ہیں۔ اس جسم کے اندر ہی اندھیرے دور ہوجاتے ہیں ، جس میں خدائی نور کی روشنی ہوتی ہےگرو کا شاباش چمکتا ہے۔ان لوگوں سے جو شک کرتے ہیں ، ان سب سے کٹ جاتا ہے جو صحابہ کرام کی صحبت ، سنگت پر اعتماد کرتے ہیں۔ساد سنگت کی کشتی میں ، غدار اور خوفناک عالمی بحر عبور کر گیا۔میرے دماغ کی خواہشات خداوند کی محبت میں ، گرو سے ملنے ، پوری ہوئیں۔ جن عقیدت مندوں نے نام کا خزانہ حاصل کیا ہے ان کے جسم و دماغ دونوں طرح مکمل طور پر تپ جاتے ہیں۔نانک ، خدا (نام کا خزانہ) صرف ان لوگوں کو دیتا ہے جو اس کے حکم کے آگے ہتھیار ڈال دیتے ہیں۔ گوری ، پانچواں مہر:مہربانی فرما ، میری زندگی کے پروردگار اور رحم کرنے والا ہو۔ میں بے بس ہوں ، اور میں تیری حرمت کو تلاش کرتا ہوں ، خدابراہ کرم ، مجھے اپنا ہاتھ دے ، اور مجھے گہرے اندھیرے گڑھے میں سے اٹھا۔ مجھ سے ذرا بھی چالاک نہیں ہے۔
آپ کرنے والے ، اسباب کی وجہ – آپ سب کچھ ہیں۔ آپ سب طاقت ور ہیں۔ تیرے سوا کوئی دوسرا نہیں۔آپ ہی اپنی حالت اور حد کو جانتے ہو۔ وہ تنہا ہی آپ کے خادم بن جاتے ہیں ، جن کے ماتھے پر ایسی اچھی منزل مقصود ہے۔ آپ اپنے خادم ، خدا کے ساتھ مدہوش ہیں۔ آپ کے عقیدت مند آپ کے تانے بانے میں ، کے ذریعے اور اس کے ذریعے بنے ہوئے ہیں۔اے پیارے محبوب ، وہ تیرے نام اور تیرے درشن کے بصیرت کے متمنی ہیں ، جیسے چکوی پرندے جو چاند دیکھنے کے خواہشمند ہیں۔ خداوند اور اس کے سینٹ کے درمیان ، کوئی فرق نہیں ہے۔ سیکڑوں ہزاروں اور لاکھوں افراد میں ، یہاں تک کہ شاید ہی ایک شائستہ وجود ہے۔وہ لوگ جن کے دل خدا کو منور کرتے ہیں ، رات دن ان کی زبان سے اس کی حمد کا کیترن گاتے ہیں آپ سب ہی طاقت ور اور لامحدود ، سب سے بلند اور بلند ، امن دینے والا ہے۔ اے خدا ، تو زندگی کی سانسوں کا سہارا ہے
براہ کرم ، نانک پر رحم کریں ، اے خدا ، وہ سنتوں کی سوسائٹی میں رہے۔
گئُڑی محلا 5॥
تُم ہرِ سیتی راتے سنّتہُ ۔ ॥
نِباہِ لیہُ مۄ کءُ پُرکھ بِدھاتے
اۄڑِ پہُچاوہُ داتے ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
تُمرا مرمُ تُما ہی جانِیا
تُم پۄُرن پُرکھ بِدھاتے ۔ ॥
راکھہُ سرݨِ اناتھ دیِن کءُ
کرہُ ہماری گاتے ॥1॥
ترݨ ساگر بۄہِتھ چرݨ تُمارے
تُم جانہُ اپُنی بھاتے ॥
کرِ کِرپا جِسُ راکھہُ سنّگے
تے تے پارِ پراتے ॥2॥
ایِت اۄُت پ٘ربھ تُم سمرتھا
سبھُ کِچھُ تُمرےَ ہاتھے ॥
ایَسا نِدھانُ دیہُ مۄ کءُ
ہرِ جن چلےَ ہمارےَ ساتھے ॥3॥
نِرگُنیِیارے کءُ گُنُ کیِجےَ
ہرِ نامُ میرا منُ جاپے ॥
سنّت پ٘رسادِ نانک ہرِ بھیٹے
من تن سیِتل دھ٘راپے ॥4॥ 14 ॥ 135 ॥
گئُڑی محلا 5॥
سہجِ سمائِئۄ دیو ॥
مۄ کءُ ستِگُر بھۓ دئِیال دیو ॥1॥ رہاءُ ॥
کاٹِ جیوری کیِئۄ داسرۄ
سنّتن ٹہلائِئۄ ॥
ایک نام کۄ تھیِئۄ پۄُجاری
مۄ کءُ اچرجُ گُرہِ دِکھائِئۄ ॥1॥
بھئِئۄ پ٘رگاسُ سرب اُجیِیارا
گُر گِیانُ منہِ پ٘رگٹائِئۄ ॥
انّم٘رِتُ نامُ پیِئۄ منُ ت٘رِپتِیا
انبھےَ ٹھہرائِئۄ ॥2॥
مانِ آگِیا سرب سُکھ پاۓ
دۄُکھہ ٹھاءُ گوائِئۄ ॥
جءُ سُپ٘رسنّن بھۓ پ٘ربھ ٹھاکُر
سبھُ آند رۄُپُ دِکھائِئۄ ॥3॥
نا کِچھُ آوت نا کِچھُ جاوت
سبھُ کھیلُ کیِئۄ ہرِ رائِئۄ ॥
کہُ نانک اگم اگم ہےَ ٹھاکُر
بھگت ٹیک ہرِ نائِئۄ ॥4॥ 15 ॥ 136 ॥
گئُڑی محلا 5॥
پارب٘رہم پۄُرن پرمیسُر
من تا کی اۄٹ گہیِجےَ رے ॥
جِنِ دھارے ب٘رہمنّڈ کھنّڈ ہرِ
تا کۄ نامُ جپیِجےَ رے ॥1॥ رہاءُ ॥
من کی متِ تِیاگہُ ہرِ جن
حُکمُ بۄُجھِ سُکھُ پائیِۓَ رے ॥
جۄ پ٘ربھُ کرےَ سۄئی بھل مانہُ
سُکھِ دُکھِ اۄہی دھِیائیِۓَ رے ॥1॥
کۄٹِ پتِت اُدھارے کھِن مہِ
کرتے بار ن لاگےَ رے ॥
دیِن درد دُکھ بھنّجن سُیامی
جِسُ بھاوےَ تِسہِ نِوازےَ رے ॥2॥
سبھ کۄ مات پِتا پ٘رتِپالک
جیء پ٘ران سُکھ ساگرُ رے ॥
دینْدے تۄٹِ ناہی تِسُ کرتے
پۄُرِ رہِئۄ رتناگرُ رے ॥3॥
جاچِکُ جاچےَ نامُ تیرا سُیامی
گھٹ گھٹ انّترِ سۄئی رے ॥
نانک داسُ تا کی سرݨائی
جا تے ب٘رِتھا ن کۄئی رے ॥4॥ 16 ॥ 137 ॥
ترجمہ
گوری ، پانچواں مہر:اے سینٹ ، آپ خداوند سے ملحق ہے۔براہ کرم میرے ساتھ کھڑے ہو ، تقدیر کا معمار؛ براہ کرم مجھے اپنی منزل تک لے جائیں ،عظیم دینے والا۔تم اکیلے ہی اپنا معمہ جانتے ہو۔ آپ مقدر کا کامل معمار ہیں۔میں ایک لاچار یتیم ہوں – براہ کرم مجھے اپنی حفاظت میں رکھیں اور مجھے بچائیں۔آپ کے پاؤں بحری جہاز میں ہمیں لے جانے کے لئے کشتی ہیں۔ تم اکیلے ہی اپنے طریقے جانتے ہو۔وہ لوگ جن کی آپ حفاظت کرتے ہیں ، اپنی مہربانی سے ، دوسری طرف پار ہوجاتے ہیں۔یہاں اور آخرت ، خدا ، تو سب طاقت ور ہے۔ سب کچھ آپ کے ہاتھ میں ہے۔اے رب کے خادم ، مجھے وہ خزانہ دے جو میرے ساتھ چلے گا۔میں فضیلت والا نہیں ہوں – براہ کرم مجھے فضیلت سے نوازے ، تاکہ میرا دماغ رب کے نام کے منتر ہو۔سنتوں کے فضل سے ، نانک نے رب سے ملاقات کی۔ اس کا دماغ اور جسم مطمئن اور مطمئن ہیں۔گوری ، پانچواں مہر:میں بدیہی طور پر خدائے بزرگ میں مشغول ہوں۔خدائی حقیقی گرو مجھ پر مہربان ہوگیا ہے۔ہیلٹر کاٹ کر ، اس نے مجھے اپنا غلام بنا لیا ، اور اب میں سنتوں کے لئے کام کرتا ہوں۔میں ایک ہی نام کا پرستار بن گیا ہوں۔ گرو نے مجھے یہ حیرت انگیز تعجب دکھایا ہے۔آسمانی نور چمک گیا ، اور سب کچھ روشن ہے۔ گرو نے یہ روحانی حکمت میرے دماغ پر ظاہر کی ہے۔خداوند کا نام ، حیرت انگیز نام کے گہرائی سے پینے سے ، میرا دماغ مطمئن ہوگیا ، اور میرا خوف ختم ہوگیا۔ خداوند کی مرضی کے حکم کو قبول کرتے ہوئے ، مجھے پوری سکون ملا ہے۔ مصائب کا گھر تباہ ہوچکا ہے۔جب خدا ، ہمارے رب اور مالک مطمئن تھے ، اس نے ہر چیز کو خوشی کی صورت میں ظاہر کیا۔کچھ نہیں آتا ہے ، اور کچھ نہیں جاتا ہے۔ یہ ڈرامہ خداوند ، بادشاہ بادشاہ کے ذریعہ حرکت میں آیا ہے۔نانک کہتے ہیں ، ہمارے رب و آقا ناقابل رسائی اور ناقابل معافی ہیں۔ خداوند کے عقیدت مند اس کے نام کو ان کی حمایت کرتے ہیں
گوری ، پانچواں مہر:وہی زبردست پروردگار خدا ہے۔ اے میرے ذہن ، ایک کی تائید کو مضبوطی سے تھام لوجس نے شمسی نظام اور کہکشائیں قائم کیں۔ اس رب کا نام لے لو۔اے رب کے شائستہ نوکروں ، اپنے دماغ کی فکری ہوشیاری کو ترک کرو۔ اس کے حکم کے حکم کو سمجھنے سے ، امن مل جاتا ہے۔جو کچھ خدا کرتا ہے اسے خوشی سے قبول کرو۔ آرام اور تکلیف میں ، اس پر غور کرو۔
خالق ایک لمحے کی تاخیر کے بغیر ، لاکھوں گنہگاروں کو ایک دم فوری طور پر آزاد کراتا ہے۔غریبوں کے دکھ اور رنج کو ختم کرنے والا رب ان لوگوں کو سلامت رکھتا ہے جن سے وہ راضی ہوتا ہے۔ وہ ماں اور باپ ہے ، سب کا پالنے والا؛ وہ تمام مخلوقات کی زندگی کا سانس ہے ، بحر امن ہے۔اتنی فراخدلی سے دیتے ہوئے ، خالق بالکل کم نہیں ہوتا ہے۔ زیورات کا ماخذ ، وہ ہر طرف پھیل رہا ہے۔
بھکاری آپ کے نام کے لئے بھیک مانگتا ہے ، اے رب اور مالک۔ خدا ہر دل کے مرکز کے اندر گہرائی میں موجود ہے۔غلام نانک اپنے حرم میں داخل ہوا ہے۔ کوئی بھی اس سے خالی ہاتھ نہیں لوٹتا۔
راگُ گئُڑی پۄُربی محلا 5
ੴ ستِگُر پ٘رسدِ ॥
ہرِ ہرِ کبہۄُ ن منہُ بِسارے ॥
ایِہا اۄُہا سرب سُکھداتا
سگل گھٹا پ٘رتِپارے ॥1॥ رہاءُ ॥
مہا کسٹ کاٹےَ کھِن بھیِترِ
رسنا نامُ چِتارے ॥
سیِتل سانْتِ سۄُکھ ہرِ سرݨی
جلتی اگنِ نِوارے ॥1॥
گربھ کُنّڈ نرک تے راکھےَ
بھوجلُ پارِ اُتارے ॥
چرن کمل آرادھت من مہِ
جم کی ت٘راس بِدارے ॥2॥
پۄُرن پارب٘رہم پرمیسُر
اۄُچا اگم اپارے ॥
گُݨ گاوت دھِیاوت سُکھ ساگر
جۄُۓ جنمُ ن ہارے ॥3॥
کامِ ک٘رۄدھِ لۄبھِ مۄہِ منُ لیِنۄ
نِرگُݨ کے داتارے ۔ ॥
کرِ کِرپا اپُنۄ نامُ دیِجےَ
نانک سد بلِہارے ॥4॥1॥ 138 ॥
راگُ گئُڑی چیتی 1 محلا 5
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
سُکھُ ناہی رے ہرِ بھگتِ بِنا ॥
جیِتِ جنمُ اِہُ رتنُ امۄلکُ
سادھسنّگتِ جپِ اِک کھِنا ॥1॥ رہاءُ ॥
سُت سنّپتِ بنِتا بِنۄد ॥
چھۄڈِ گۓ بہُ لۄگ بھۄگ ॥1॥
ہیَور گیَور راج رنّگ ॥
تِیاگِ چلِئۄ ہےَ مۄُڑ ننّگ ॥2॥
چۄیا چنّدن دیہ پھۄُلِیا ॥
سۄ تنُ دھر سنّگِ رۄُلِیا ॥3॥
مۄہِ مۄہِیا جانےَ دۄُرِ ہےَ ॥
کہُ نانک سدا حدۄُرِ ہےَ ॥4॥1॥ 139 ॥
گئُڑی محلا 5॥
من دھر تربے ہرِ نام نۄ ॥
ساگر لہرِ سنّسا سنّسارُ
گُرُ بۄہِتھُ پار گرامنۄ ॥1॥ رہاءُ ॥
کلِ کالکھ انّدھِیاریِیا ॥
گُر گِیان دیِپک اُجِیاریِیا ॥1॥
بِکھُ بِکھِیا پسری اتِ گھنی ॥
اُبرے جپِ جپِ ہرِ گُنی ॥2॥
متوارۄ مائِیا سۄئِیا ॥
گُر بھیٹت بھ٘رمُ بھءُ کھۄئِیا ॥3॥
کہُ نانک ایکُ دھِیائِیا ॥
گھٹِ گھٹِ ندری آئِیا ॥4॥2॥ 140 ॥
گئُڑی محلا 5॥
دیِبانُ ہمارۄ تُہی ایک ॥
سیوا تھاری گُرہِ ٹیک ॥1॥ رہاءُ ॥
انِک جُگتِ نہی پائِیا ॥
گُرِ چاکر لےَ لائِیا ॥1॥
مارے پنّچ بِکھادیِیا ॥
گُر کِرپا تے دلُ سادھِیا ॥2॥
بخشیِس وجہُ مِلِ ایکُ نام ॥
سۄُکھ سہج آننّد بِس٘رام ॥3॥
ترجمہ
راگ گوری پوربی ، پانچواں مہر:ایک آفاقی خالق خدا۔ سچے گرو کی مہربانی سے:رب ، ہار ، ہار کو کبھی بھی اپنے دماغ سے مت بھولو۔یہاں اورآخر ، وہ تمام سلامتی کا عطا کرنے والا ہے۔ وہ تمام دلوں کا پالنے والا ہے۔وہ شخص جو نام پر مستقل طور پر غور کرتا ہے ، وہ ایک لمحے میں تمام تر تکلیفوں (وسوسوں اور لگاؤ) کو دور کرتا ہے۔وہ جو خدا کی پناہ مانگتے ہیں ، وہ ان کے دلوں میں آگ (خواہش کی) آگ بجھا دیتا ہے ، اور وہ سکون ، راحت ، سکون اور روحانی خوشی کا احساس محسوس کرتے ہیں۔وہ ہمیں رحم کے نرگس گڑھے سے بچاتا ہے ، اور خوفناک دنیا کے سمندر میں لے جاتا ہے۔
ذہن میں اس کے لوٹس کے پاؤں کی پیار سے (عاجزی سے اس کا پیغام قبول کرتے ہوئے) موت کا خوف ختم ہوجاتا ہے۔ وہ کامل ، زبردست خدا ، ماورائی ، بلند ، بے محل اور لاتعداد ہے۔اس کی عمدہ تعریفیں گانا ، اور بحر امن کے مراقبہ پر غور کرنا ، کسی کی زندگی جوئے میں کھو نہیں جاتا ہے۔ میرا دماغ جنسی خواہش ، غصہ ، لالچ اور لگاؤ میں مبتلا ہے ، اے نا اہل کو عطا کرنے والابراہ کرم اپنا فضل عطا فرما ، اور مجھے اپنے نام سے نوازے۔ نانک ہمیشہ کے لئے آپ کے لئے قربانی ہے۔ راگ گوری چاٹی ، پانچواں مہر:ایک آفاقی خالق خدا۔ سچے گرو کی مہربانی سے:رب کی عقیدت مند عبادت کے بغیر کوئی سکون نہیں ہے۔فاتح بنو ، اور ایک لمحہ کے لئے بھی ، مقدس کمپنی ، صحبت سنگت میں اس کا دھیان دے کر ، اس انسانی زندگی کا انمول زیور جیتا۔بہت سے لوگوں نے اپنے بچوں ، دولت ، شریک حیات ، خوشگوار کھیلوں اور خوشیوں سے دستبردار ہوکر چھوڑ دیا ہے۔گھوڑے ، ہاتھی اور اقتدار کی خوشیاں- ان کو چھوڑ کر ، احمق کو برہنہ ہونا چاہئے۔ جسم ، کستوری اور صندل کی لکڑیوں سے خوشبو والا- وہ جسم خاک میں ملنے آئے گا۔ جذباتی لگاؤ سے متاثر ہو کر ، وہ یہ سمجھتے ہیں کہ خدا بہت دور ہے۔نانک کہتے ہیں ، وہ ہمیشہ حاضر ہے۔گوری ، پانچواں مہر:اے دماغ ، خداوند کے نام کی تائید کے ساتھ پار ہوجاؤ۔گرو ایک ایسی کشتی ہے جو آپ کو طنز اور شک کی لہروں سے لے کر دنیا کے سمندر میں پار لے جاتی ہے۔کالی یوگا کے اس تاریک دور میں ، اندھیرے میں صرف اندھیرا ہی ہے۔
گرو کی روحانی حکمت کا چراغ روشن اور روشن ہوتا ہے۔بدعنوانی کا زہر دور دور تک پھیلا ہوا ہے۔
صرف نیک لوگ ہی نجات پاتے ہیں ، خداوند کا نعرہ لگاتے اور غور کرتے ہیں۔مایا کے نشے میں ، لوگ سو رہے ہیں۔گرو سے ملنا ، شک اور خوف دور ہوجاتے ہیں۔ نانک کہتے ہیں ، ایک ہی رب کا ذکر کرو۔اسے ہر دل میں دیکھیں۔ گوری ، پانچواں مہر:تم اکیلے ہی میرے چیف ایڈوائزر ہو۔میں گرو کی مدد سے آپ کی خدمت کرتا ہوں۔ مختلف آلات کے ذریعہ ، میں آپ کو نہیں ڈھونڈ سکا۔مجھے پکڑ کر گرو نے مجھے اپنا غلام بنا لیا ہے۔میں نے پانچ ظالموں کو فتح کرلی ہے۔گرو کے فضل سے ، میں نے شر کی فوج کو فتح کر لیا ہے۔ مجھے اس کا فضل و کرم کے نام سے ایک نام ملا ہے۔اب ، میں سکون ، سکون اور خوشی میں رہتا ہوں۔
پ٘ربھ کے چاکر سے بھلے ॥
نانک تِن مُکھ اۄُجلے ॥4॥3॥ 141 ॥
گئُڑی محلا 5॥
جیِئرے اۄل٘ہا نام کا ॥
اورُ جِ کرن کراونۄ
تِن مہِ بھءُ ہےَ جام کا ॥1॥ رہاءُ ॥
اور جتنِ نہی پائیِۓَ ॥
وڈےَ بھاگِ ہرِ دھِیائیِۓَ ॥1॥
لاکھ حِکمتی جانیِۓَ ॥
آگےَ تِلُ نہی مانیِۓَ ॥2॥
اہنّبُدھِ کرم کماونے ॥
گ٘رِہ بالۄُ نیِرِ بہاونے ॥3॥
پ٘ربھُ ک٘رِپالُ کِرپا کرےَ ॥
نامُ نانک سادھۄُ سنّگِ مِلےَ ॥4॥4॥ 142 ॥
گئُڑی محلا 5॥
بارنےَ بلِہارنےَ
لکھ بریِیا ॥
نامۄ ہۄ نامُ صاحِب کۄ
پ٘ران ادھریِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
کرن کراون تُہی ایک ॥
جیء جنّت کی تُہی ٹیک ॥1॥
راج جۄبن پ٘ربھ تۄُنّ دھنی ॥
تۄُنّ نِرگُن تۄُنّ سرگُنی ॥2॥
ایِہا اۄُہا تُم رکھے ॥
گُر کِرپا تے کۄ لکھے ॥3॥
انّترجامی پ٘ربھ سُجانُ ۔ ॥
نانک تکیِیا تُہی تاݨُ ॥4॥5॥ 143 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ہرِ ہرِ ہرِ آرادھیِۓَ ॥
سنّتسنّگِ ہرِ منِ وسےَ
بھرمُ مۄہُ بھءُ سادھیِۓَ ॥1॥ رہاءُ ॥
بید پُراݨ سِم٘رِتِ بھنے ॥
سبھ اۄُچ بِراجِت جن سُنے ॥1॥
سگل استھان بھےَ بھیِت چیِن ॥
رام سیوک بھےَ رہت کیِن ॥2॥
لکھ چئُراسیِہ جۄنِ پھِرہِ ॥
گۄبِنّد لۄک نہی جنمِ مرہِ ॥3॥
بل بُدھِ سِیانپ ہئُمےَ رہی ॥
ہرِ سادھ سرݨِ نانک گہی ॥4॥6॥ 144 ॥
گئُڑی محلا 5॥
من رام نام گُن گائیِۓَ ॥
نیِت نیِت ہرِ سیویِۓَ
ساسِ ساسِ ہرِ دھِیائیِۓَ ॥1॥ رہاءُ ॥
سنّتسنّگِ ہرِ منِ وسےَ ॥
دُکھُ دردُ انیرا بھ٘رمُ نسےَ ॥1॥
سنّت پ٘رسادِ ہرِ جاپیِۓَ ॥
سۄ جنُ دۄُکھِ ن وِیاپیِۓَ ॥2॥
جا کءُ گُرُ ہرِ منّت٘رُ دے ॥
سۄ اُبرِیا مائِیا اگنِ تے ॥3॥
نانک کءُ پ٘ربھ مئِیا کرِ ॥
میرےَ منِ تنِ واسےَ نامُ ہرِ ॥4॥7॥ 145 ॥
گئُڑی محلا 5॥
رسنا جپیِۓَ ایکُ نام ॥
ایِہا سُکھُ آننّدُ گھنا
آگےَ جیء کےَ سنّگِ کام ॥1॥ رہاءُ ॥
کٹیِۓَ تیرا اہنّ رۄگُ ॥
تۄُنّ گُر پ٘رسادِ کرِ راج جۄگُ ॥1॥
ہرِ رسُ جِنِ جنِ چاکھِیا ॥
تا کی ت٘رِسنا لاتھیِیا ॥2॥
ہرِ بِس٘رام نِدھِ پائِیا ॥
سۄ بہُرِ ن کت ہی دھائِیا ॥3॥
ہرِ ہرِ نامُ جا کءُ گُرِ دیِیا ॥
نانک تا کا بھءُ گئِیا ॥4॥8॥ 146 ॥
ترجمہ
خدا کے بندے اچھے ہیں۔نانکے ، ان کے چہرے روشن ہیں۔گوری ، پانچواں مہر:ارے ، جان: آپ کا واحد سہارا نام ہے ،آپ جو کچھ بھی کرتے یا کرتے ہو ، موت کا خوف اب بھی آپ پر لپٹ جاتا ہے۔وہ کسی اور کوشش سے حاصل نہیں ہوا ہے۔بڑی خوش قسمتی سے ، خداوند کا ذکر کرو۔ آپ سیکڑوں ہزاروں چالاک چالوں کو جان سکتے ہو ،لیکن اس کے بعد بھی کسی کا فائدہ نہیں ہوگا۔ انا کے غرور میں کئے اچھے اعمال بہہ جاتے ہیں ، جیسے پانی سے ریت کے گھر۔ جب اللہ رحیم اپنی رحمت کا مظاہرہ کرتا ہے ،نانک نے سعادت سنگت ، ناموس رسالت ، میں نام حاصل کیا۔گوری ، پانچواں مہر:میں ایک قربانی ہوں ، ہزاروں بار اپنے رب و مالک کے لئے وقف ہوں۔اس کا نام ، اور اس کا نام ہی ، زندگی کی سانسوں کا سہارا ہے۔آپ اکیلے ہی کام کرنے والے ہیں ، اسباب کا سبب ہیں۔آپ تمام مخلوقات اور مخلوق کا سہارا ہے۔ اے خدا ، تم میری طاقت ، اختیار اور جوانی ہو۔ آپ بالکل اوصاف کے بغیر مطلق ہیں ، اور اس سے بھی وابستہ ہیں۔ یہاں اور آخرت کے بعد ، آپ میرے نجات دہندہ اور مددگار ہیں۔گرو کے فضل سے ، کچھ آپ کو سمجھتے ہیں۔ خدا جاننے والا ، باطن ہے اور دلوں کو جاننے والا ہے۔آپ نانک کی طاقت اور مددگار ہیں۔ گوری ، پانچواں مہر:رب ، ہار ، ہار ، ہار کی عبادت اور عبادت کرو۔سنتوں کی سوسائٹی میں ، وہ ذہن میں رہتا ہے۔ شبہ ، جذباتی لگاؤ اور خوف فنا ہو گئے ہیں۔وید ، پوران اور سمیرتی اعلان کرتے سنا ہے
کہ خداوند کا بندہ سب سے اعلی کے طور پر رہتا ہے۔ تمام مقامات خوف سے بھرے ہوئے ہیں – اسے اچھی طرح جان لو۔صرف خداوند کے بندے ہی خوف و ہراس سے آزاد ہیں۔لوگ 8.4 ملین اوتار کے ذریعے گھومتے ہیں۔خدا کے لوگ پیدائش اور موت سے مشروط نہیں ہیں۔ نانک لارڈز کے مقدس اولیاء کے مقدس مقام پر گئے ہیں۔ اس نے طاقت ، دانشمندی ، ہوشیاری اور غرور کو ترک کردیا ہے۔گوری ، پانچواں مہر:اے میرے دماغ ، خداوند کے نام کی حمد گاؤ۔مستقل طور پر اور خداوند کی خدمت کرو۔ ہر ایک سانس کے ساتھ ، رب کا ذکر کریں۔ سنتوں کی سوسائٹی میں ، خداوند ذہن میں بسا ہے ،اور درد ، تکلیف ، اندھیرے اور شک دور ہوجاتے ہیں۔ وہ عاجز وجود ، جو اولیا کے فضل سے ، خداوند کا ذکر کرتا ہے ، تکلیف میں مبتلا نہیں ہے۔ وہ جن کو گورو رب کے نام کا منتر دیتے ہیں ،مایا کی آگ سے بچ گئے ہیں۔ اے اللہ ، نانک کے ساتھ مہربانی کر۔خداوند کا نام میرے دماغ اور جسم میں بسے۔ گوری ، پانچواں مہر:اپنی زبان سے ایک ہی رب کے نام کا نعرہ لگاؤ۔اس دنیا میں ، یہ آپ کو امن ، سکون اور بڑی خوشی دلائے گا۔ اس کے بعد ، یہ آپ کی روح کے ساتھ چلے گا ، اور آپ کے کام آئیں گے۔ آپ کی انا کا مرض ختم ہوجائے گا۔گرو کی مہربانی سے ، راجا یوگا ، مراقبہ اور کامیابی کے یوگا پر عمل کریں۔ وہ جو رب کی ذات کا جوہر چکھتے ہیں ان کی پیاس بجھ گئی جنہوں نے سلامت کا خزانہ خداوند کو پایادوبارہ کہیں اور نہیں جانا چاہئے۔وہ ، جن کو گرو نے رب کا نام ، حار ، حار عطا کیا ہے- نانک ، ان کے خوف دور کردیئے گئے ہیں۔
گئُڑی محلا 5॥
جا کءُ بِسرےَ رام نام
تاہۄُ کءُ پیِر ॥
سادھسنّگتِ مِلِ ہرِ روہِ
سے گُݨی گہیِر ॥1॥ رہاءُ ॥
جا کءُ گُرمُکھِ رِدےَ بُدھِ ॥
تا کےَ کر تل نو نِدھِ سِدھِ ॥1॥
جۄ جانہِ ہرِ پ٘ربھ دھنی ॥
کِچھُ ناہی تا کےَ کمی ॥2॥
کرݨیَہارُ پچھانِیا ॥
سرب سۄُکھ رنّگ ماݨِیا ॥3॥
ہرِ دھنُ جا کےَ گ٘رِہِ وسےَ ॥
کہُ نانک تِن سنّگِ دُکھُ نسےَ ॥4॥9॥ 147 ॥
گئُڑی محلا 5॥
گربُ بڈۄ مۄُلُ اِتنۄ ॥
رہنُ نہی گہُ کِتنۄ ॥1॥ رہاءُ ॥
بیبرجت بید سنّتنا
اُیاہۄُ سِءُ رے ہِتنۄ ॥
ہار جۄُیار جۄُیا بِدھے
اِنّد٘ری وسِ لےَ جِتنۄ ॥1॥
ہرن بھرن سنّپۄُرنا
چرن کمل رنّگِ رِتنۄ ॥
نانک اُدھرے سادھسنّگِ
کِرپا نِدھِ مےَ دِتنۄ ॥2॥ 10 ॥ 148 ॥
گئُڑی محلا 5॥
مۄہِ داسرۄ ٹھاکُر کۄ ॥
دھانُ پ٘ربھ کا کھانا ॥1॥ رہاءُ ॥
ایَسۄ ہےَ رے خصمُ ہمارا ॥
کھِن مہِ ساجِ سوارݨہارا ॥1॥
کامُ کری جے ٹھاکُر بھاوا ॥
گیِت چرِت پ٘ربھ کے گُن گاوا ॥2॥
سرݨِ پرِئۄ ٹھاکُر وزیِرا ॥
تِنا دیکھِ میرا منُ دھیِرا ॥3॥
ایک ٹیک ایکۄ آدھارا ॥
جن نانک ہرِ کی لاگا کارا ॥4॥ 11 ॥ 149 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ہےَ کۄئی ایَسا ہئُمےَ تۄرےَ ॥
اِسُ میِٹھی تے اِہُ منُ ہۄرےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
اگِیانی مانُکھُ بھئِیا
جۄ ناہی سۄ لۄرےَ ॥
ریَݨِ انّدھاری کاریِیا
کون جُگتِ جِتُ بھۄرےَ ॥1॥
بھ٘رمتۄ بھ٘رمتۄ ہارِیا
انِک بِدھی کرِ ٹۄرےَ ॥
کہُ نانک کِرپا بھئی
سادھسنّگتِ نِدھِ مۄرےَ ॥2॥ 12 ॥ 150 ॥
گئُڑی محلا 5॥
چِنّتامݨِ کرُݨا مۓ ॥1॥ رہاءُ ॥
دیِن دئِیالا پارب٘رہم ॥
جا کےَ سِمرݨِ سُکھ بھۓ ॥1॥
اکال پُرکھ اگادھِ بۄدھ ॥
سُنت جسۄ کۄٹِ اگھ کھۓ ॥2॥
کِرپا نِدھِ پ٘ربھ مئِیا دھارِ ॥
نانک ہرِ ہرِ نام لۓ ॥3॥ 13 ॥ 151 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 5॥
میرے من سرݨِ پ٘ربھۄُ سُکھ پاۓ ॥
جا دِنِ بِسرےَ پ٘ران سُکھداتا
سۄ دِنُ جات اجاۓ ॥1॥ رہاءُ ॥
ایک ریَݨ کےَ پاہُن تُم آۓ
بہُ جُگ آس بدھاۓ ॥
گ٘رِہ منّدر سنّپےَ جۄ دیِسےَ
جِءُ ترور کی چھاۓ ॥1॥
تنُ میرا سنّپےَ سبھ میری
باغ مِلکھ سبھ جاۓ ॥
دیونہارا بِسرِئۄ ٹھاکُرُ
کھِن مہِ ہۄت پراۓ ॥2॥
ترجمہ
گوری ، پانچواں مہر:جو رب کا نام بھول جاتا ہے ، اسے تکلیف ہوتی ہے۔وہ لوگ جو صحبت کی صحبت میں شامل ہوجاتے ہیں ، اور جو خداوند کی عبادت کرتے ہیں ، وہ فضیلت کا سمندر پاتے ہیں۔
وہ گورمک جن کے دل حکمت سے بھرے ہیں ،نو خزانے ، اور سدھوں کی معجزاتی روحانی طاقتوں کو اپنے ہاتھوں میں رکھیں۔ وہ لوگ جو خالق کے ساتھ تعلقات کو تمام دولتوں کے مددگار کے طور پر استوار کرتے ہیں ، روحانی طور پر راحت بخش ہیں۔وہ جو خالق کو پہچانتے ہیں ،آسمانی سکون اور خوشی سے لطف اٹھائیں۔ وہ جن کے دل نام کی دولت سے معمور ہیں ، نانک کہتے ہیں ، ان کی صحبت میں ، کوئی تکلیف نہیں ہے اور صرف روحانی خوشی ہے۔گوری ، پانچواں مہر:آپ کا فخر بہت اچھا ہے ، لیکن آپ کی اصلیت کا کیا ہوگا؟آپ قائم نہیں رہ سکتے ، اس سے قطع نظر کہ آپ کتنی کوشش کرتے ہیں۔جو ویدوں اور سنتوں نے منع کیا ہے – اس کے ساتھ ، آپ کو پیار ہے۔جوئے باز موقع کا کھیل ہارنے کی طرح ، آپ کو حسی خواہشات کی طاقت میں گرفتار کیا جاتا ہے۔ آپ نے خالق اور پروردگار کے پیغام کو عاجزی کے ساتھ قبول نہیں کیا ،اے نانک ، میں (مایا سے) ، پاک کی صحبت میں بچایا گیا ہوں۔ مجھے رحمت کے خزانے سے نوازا گیا ہے۔گوری ، پانچواں مہر:میں اپنے پروردگار کا غلام ہوں۔خدا جو کچھ بھی دیتا ہے میں اسے کھاتا ہوں۔ ایسا ہی میرا پروردگار ہے۔ایک لمحے میں ، وہ تخلیق کرتا ہے اور سجاتا ہے۔ میں وہ کام کرتا ہوں جو میرے مالک اور مالک کو خوش ہوتا ہے۔میں خدا کی شان اور اس کے حیرت انگیز کھیل کے گیت گاتا ہوں۔ میں خداوند کے وزیر اعظم کی حرمت کی تلاش کرتا ہوں۔اس کو دیکھ کر ، میرا دماغ سکون اور راحت بخش ہے۔ ایک رب میرا سہارا ہے ، ایک میرا مستحکم اینکر ہے۔خادم نانک رب کے کام میں مصروف ہے۔ گوری ، پانچواں مہر:
کیا کوئی ہے ، جو اپنی انا کو بکھر سکتا ہے ،اور اس پیاری مایا سے اس کا دماغ پھیر لیا؟ انسانیت روحانی لاعلمی میں ہے۔ لوگ ایسی چیزیں دیکھتے ہیں جن کا کوئی وجود نہیں ہوتا۔رات تاریک اور غمناک ہے۔ صبح کیسے ہو گی؟ آوارہ گردی ، چاروں طرف گھومنا ، میں تھکا ہوا ہو گیا ہوں۔ ہر طرح کی چیزوں کی کوشش کر رہا ہوں ، میں تلاش کر رہا ہوں۔نانک کہتے ہیں ، اس نے مجھ پر رحم کیا ہے۔ مجھے ساد سنگت کا خزانہ مل گیا ہے ، حضور کی صحبت۔گوری ، پانچواں مہر:وہ خواہش کو پورا کرنے والا جیول ، رحمت کا مجسمہ ہے۔ اللہ رب العزت مسکینوں پر مہربان ہے۔اسی کا ذکر کرتے ہوئے سکون حاصل ہوتا ہے۔ نہ مرنے والے بنیادی وجود کی حکمت فہم سے بالاتر ہے۔اس کی حمد سن کر لاکھوں گناہ مٹ جاتے ہیں۔ اے خدا ، رحمت کے خزانے ، نانک کو اپنی مہربانی سے نوازے ، تاکہ وہ نام کو یاد کرے اور اس پر غور کرے۔گوری پوربی ، پانچواں مہر:اے میرے دماغ ، حرمت خدا میں امن پایا جاتا ہے۔اس دن ، جب زندگی دینے والا اور سکون بخشنے والا – وہ دن بیکار گزر جاتا ہے۔ آپ ایک مختصر رات کے لئے مہمان کی حیثیت سے آئے ہیں ، اور پھر بھی آپ کو بہت ساری عمر زندہ رہنے کی امید ہے۔گھروں ، حویلیوں اور دولت – جو کچھ بھی نظر آتا ہے وہ درخت کے سائے کی طرح ہوتا ہے۔میرا جسم ، دولت ، اور میرے تمام باغات اور املاک ختم ہوجائیں گے۔
آپ اپنے پروردگار ، عظیم دینے والے کو بھول گئے ہیں۔ ایک دم میں ، یہ کسی اور کے ہوں گے۔
پہِرےَ باگا کرِ اِسنانا
چۄیا چنّدن لاۓ ॥
نِربھءُ نِرنّکار نہی چیِنِیا
جِءُ ہستی ناواۓ ॥3॥
جءُ ہۄءِ ک٘رِپال ت ستِگُرُ میلےَ
سبھِ سُکھ ہرِ کے ناۓ ॥
مُکتُ بھئِیا بنّدھن گُرِ کھۄلے
جن نانک ہرِ گُݨ گاۓ ॥4॥ 14 ॥ 152 ॥
گئُڑی پۄُربی محلا 5॥
میرے من گُرُ گُرُ گُرُ سد کریِۓَ ॥
رتن جنمُ سپھلُ گُرِ کیِیا
درسن کءُ بلِہریِۓَ ॥1॥ رہاءُ ॥
جیتے ساس گ٘راس منُ لیتا
تیتے ہی گُن گائیِۓَ ॥
جءُ ہۄءِ دیَیالُ ستِگُرُ اپُنا
تا اِہ متِ بُدھِ پائیِۓَ ॥1॥
میرے من نامِ لۓ جم بنّدھ تے چھُٹہِ
سرب سُکھا سُکھ پائیِۓَ ॥
سیوِ سُیامی ستِگُرُ داتا
من بنّچھت پھل پائیِۓَ ॥2॥
نامُ اِسٹُ میِت سُت کرتا
من سنّگِ تُہارےَ چالےَ ॥
کرِ سیوا ستِگُر اپُنے کی
گُر تے پائیِۓَ پالےَ ॥3॥
گُرِ کِرپالِ ک٘رِپا پ٘ربھِ دھاری
بِنسے سرب انّدیسا ॥
نانک سُکھُ پائِیا ہرِ کیِرتنِ
مِٹِئۄ سگل کلیسا ॥4॥ 15 ॥ 153 ॥
راگُ گئُڑی محلا 5
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
ت٘رِسنا بِرلے ہی کی بُجھی ہے ॥1॥ رہاءُ ॥
کۄٹِ جۄرے لاکھ ک٘رۄرے
منُ ن ہۄرے ॥
پرےَ پرےَ ہی کءُ لُجھی ہے ॥1॥
سُنّدر ناری انِک پرکاری
پر گ٘رِہ بِکاری ॥
بُرا بھلا نہی سُجھی ہے ॥2॥
انِک بنّدھن مائِیا بھرمتُ بھرمائِیا
گُݨ نِدھِ نہی گائِیا ॥
من بِکھےَ ہی مہِ لُجھی ہے ॥3॥
جا کءُ رے کِرپا کرےَ جیِوت سۄئی مرےَ
سادھسنّگِ مائِیا ترےَ ॥
نانک سۄ جنُ درِ ہرِ سِجھی ہے ॥4॥1॥ 154 ॥
گئُڑی محلا 5॥
سبھہۄُ کۄ رسُ ہرِ ہۄ ॥1॥ رہاءُ ॥
کاہۄُ جۄگ کاہۄُ بھۄگ
کاہۄُ گِیان کاہۄُ دھِیان ॥
کاہۄُ ہۄ ڈنّڈ دھرِ ہۄ ॥1॥
کاہۄُ جاپ کاہۄُ تاپ
کاہۄُ پۄُجا ہۄم نیم ॥
کاہۄُ ہۄ گئُنُ کرِ ہۄ ॥2॥
کاہۄُ تیِر کاہۄُ نیِر
کاہۄُ بید بیِچار ॥
نانکا بھگتِ پ٘رِء ہۄ ॥3॥2॥ 155 ॥
گئُڑی محلا 5॥
گُن کیِرتِ نِدھِ مۄری ॥1॥ رہاءُ ॥
تۄُنّہی رس تۄُنّہی جس
تۄُنّہی رۄُپ تۄُہی رنّگ ॥
آس اۄٹ پ٘ربھ تۄری ॥1॥
تۄُہی مان تۄُنّہی دھان
تۄُہی پتِ تۄُہی پ٘ران ॥
گُرِ تۄُٹی لےَ جۄری ॥2॥
تۄُہی گ٘رِہِ تۄُہی بنِ
تۄُہی گاءُ تۄُہی سُنِ ॥
ترجمہ
تم سفید کپڑے پہنتے ہو اور صاف غسل کرتے ہو ، اور اپنے آپ کو صندل کے تیل سے مسح کرتے ہو۔لیکن آپ کو نڈر ، بے غرض خدا کو یاد نہیں ، آپ ایک ہاتھی کی طرح ہیں جو کیچڑ میں نہاتے ہیں۔
جب خدا مہربان ہوجاتا ہے ، تو وہ آپ کو گرو سے ملنے کی طرف راغب کرتا ہے۔ روحانی اور دوسری خوشی نام میں ہے۔گرو نے مجھے غلامی سے آزاد کیا ہے۔ خادم نانک رب کی تسبیح گاتے ہیں۔گوری ، پانچواں مہر:اے میرے دماغ ، ہمیشہ گرو ، گرو ، گرو پر قائم رہو۔گرو نے اس انسانی زندگی کے زیور کو خوشحال اور نتیجہ خیز بنا دیا ہے۔ میں اس کے درشن کے بابرکت نظریہ پر قربان ہوں جتنی بھی سانسیں اور نوحے اٹھتے ہیں ، اے میرے دماغ – اتنی بار ، اس کی حمد گاؤجب سچ گورو مہربان ہوجاتا ہے ، تب یہ دانشمندی اور سمجھ بوجھ مل جاتی ہےاے میرے ذہن ، نام لے کر ، آپ کو موت کی غلامی سے رہا کیا جائے گا ، اور تمام امن کا سکون مل جائے گا۔اپنے پروردگار اور مالک ، سچے گرو ، عظیم دینے والے کی خدمت کرتے ہوئے ، آپ کو اپنے دماغ کی خواہشات کا ثمر ملے گا۔خالق کا نام آپ کا پیارا دوست اور بچہ ہے۔ اے میرے دماغ ، یہ تنہا آپ کے ساتھ چلے گا۔اے دماغ ، گرو کے حرم میں جاؤ ، اس کے فضل سے آپ کو نام ملے گا۔جب رحمن گرو نے خدا نے مجھ پر اپنی رحمت کا اظہار کیا تو میری ساری پریشانی دور ہوگئی۔نانک نے رب کی حمد کے کیرٹن کی سکون حاصل کرلی اس کے سارے دکھ دور ہوگئے ہیں۔راگ گوری ، پانچواں مہر:ایک آفاقی خالق خدا۔ سچے گرو کی مہربانی سے:صرف چند لوگوں کی پیاس بجھ جاتی ہے۔لوگ سیکڑوں ہزاروں ، لاکھوں ، دسیوں لاکھوں کو جمع کرسکتے ہیں ، اور پھر بھی ذہن پر قابو نہیں پایا جاتا ہے۔وہ صرف زیادہ سے زیادہ کے لئے ترس رہے ہیں۔ ان میں ہر طرح کی خوبصورت خواتین ہوسکتی ہیں ، لیکن پھر بھی ، وہ دوسروں کے گھروں میں زنا کرتے ہیں۔وہ اچھے اور برے میں تمیز نہیں رکھتے۔ وہ کھوئے ہوئے ، مایا کے ہزارہا بندھنوں میں پھنسے پھرتے ہیں۔ وہ فضیلت کے خزانے کی ستائش نہیں گاتے۔ان کے دماغ زہر اور بدعنوانی میں مگن ہیں۔وہ ، جن پر خداوند اپنا کرم کرتا ہے ، وہ زندہ رہتے ہوئے مردہ رہتے ہیں۔ صحبت سنگت میں ، حضور کی صحبت ، وہ مایا کے سمندر پار کرتے ہیں۔نانک ، ان شائستہ انسانوں کو خداوند کے دربار میں اعزاز حاصل ہے۔گوری ، پانچواں مہر:رب سب کا جوہر ہے۔ کچھ یوگا کی مشق کرتے ہیں ، کچھ خوشی میں مبتلا ہوتے ہیں۔ کچھ روحانی حکمت کے ساتھ رہتے ہیں ،کچھ مراقبہ میں رہتے ہیں۔کچھ عملے کے حامل ہیں۔کچھ مراقبہ میں نعرے لگاتے ہیں ، کچھ گہری مشق کرتے ہیں ، وسعت کے لحاظ سے۔ کچھ اس کی عبادت میں عبادت کرو ، کچھ روزانہ کی رسومات پر عمل کریں۔کچھ آوارہ زندگی بسر کرتے ہیں۔کچھ ساحل کے کنارے رہتے ہیں ، کچھ پانی پر رہتے ہیں۔ کچھ ویدوں کا مطالعہ کرتے ہیں۔نانک خدا کی عبادت کرنا پسند کرتے ہیں۔ گوری ، پانچواں مہر:خداوند کی حمد کے کیترن گانا میرا خزانہ ہے۔تم میری خوشی ہو ، تم میری تعریف ہو۔ تم میرا حسن ہو ، تم میری محبت ہو۔اے خدا ، تم میری امید اور مددگار ہو۔ تم میرا فخر ہو ، تم میری دولت ہو۔ تم میری عزت ہو ، تم میری زندگی کی سانس ہو۔گرو نے اس کی مرمت کی ہے جو ٹوٹی تھی۔آپ گھر میں ہیں ، اور آپ جنگل میں ہیں۔ آپ گاؤں میں ہیں ، اور آپ بیابان میں ہیں۔
ہےَ نانک نیر نیری ॥3॥3॥ 156 ॥
گئُڑی محلا 5॥
ماتۄ ہرِ رنّگِ ماتۄ ॥1॥ رہاءُ ॥
اۄُہی پیِئۄ اۄُہی کھیِئۄ
گُرہِ دیِئۄ دانُ کیِئۄ ॥
اُیاہۄُ سِءُ منُ راتۄ ॥1॥
اۄُہی بھاٹھی اۄُہی پۄچا
اُہی پِیارۄ اُہی رۄُچا ॥
منِ اۄہۄ سُکھُ جاتۄ ॥2॥
سہج کیل اند کھیل
رہے پھیر بھۓ میل ॥
نانک گُر سبدِ پراتۄ ॥3॥4॥ 157 ॥
راگُ گۄَڑی مالوا محلا 5
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
ہرِ نامُ لیہُ میِتا لیہُ
آگےَ بِکھم پنّتھُ بھیَیان ॥1॥ رہاءُ ॥
سیوت سیوت سدا سیوِ
تیرےَ سنّگِ بستُ ہےَ کالُ ॥
کرِ سیوا تۄُنّ سادھ کی
ہۄ کاٹیِۓَ جم جالُ ॥1॥
ہۄم جگ تیِرتھ کیِۓ
بِچِ ہئُمےَ بدھے بِکار ॥
نرکُ سُرگُ دُءِ بھُنّچنا
ہۄءِ بہُرِ بہُرِ اوتار ॥2॥
سِو پُری ب٘رہم اِنّد٘ر پُری
نِہچلُ کۄ تھاءُ ناہِ ॥
بِنُ ہرِ سیوا سُکھُ نہی
ہۄ ساکت آوہِ جاہِ ॥3॥
جیَسۄ گُرِ اُپدیسِیا
مےَ تیَسۄ کہِیا پُکارِ ॥
نانک کہےَ سُنِ رے منا
کرِ کیِرتنُ ہۄءِ اُدھارُ ॥4॥1॥ 158 ॥
راگُ گئُڑی مالا محلا 5
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
پائِئۄ بال بُدھِ سُکھُ رے ॥
ہرکھ سۄگ ہانِ مِرتُ دۄُکھ سُکھ
چِتِ سمسرِ گُر مِلے ॥1॥ رہاءُ ॥
جءُ لءُ ہءُ کِچھُ سۄچءُ چِتوءُ
تءُ لءُ دُکھنُ بھرے ॥
جءُ ک٘رِپال گُرُ پۄُرا بھیٹِیا
تءُ آند سہجے ॥1॥
جیتی سِیانپ کرم ہءُ کیِۓ
تیتے بنّدھ پرے ॥
جءُ سادھۄُ کرُ مستکِ دھرِئۄ
تب ہم مُکت بھۓ ॥2॥
جءُ لءُ میرۄ میرۄ کرتۄ
تءُ لءُ بِکھُ گھیرے ॥
منُ تنُ بُدھِ ارپی ٹھاکُر کءُ
تب ہم سہجِ سۄۓ ॥3॥
جءُ لءُ پۄٹ اُٹھائی چلِئءُ
تءُ لءُ ڈان بھرے ॥
پۄٹ ڈارِ گُرُ پۄُرا مِلِیا
تءُ نانک نِربھۓ ॥4॥1॥ 159 ॥
گئُڑی مالا محلا 5॥
بھاونُ تِیاگِئۄ ری تِیاگِئۄ ॥
تِیاگِئۄ مےَ گُر مِلِ تِیاگِئۄ ॥
سرب سُکھ آننّد منّگل رس
مانِ گۄبِنّدےَ آگِئۄ ॥1॥ رہاءُ ॥
ترجمہ
اے نانک ، خدا تمام مخلوقات کے بہت قریب رہتا ہےراگ گوری ، پانچویں گرو:میں بھی نشے میں ہوں لیکن خدا کی محبت سے نشہ میں ہوں۔ میں اسے پیتا ہوں – میں اس کے ساتھ نشے میں ہوں۔ گرو نے صدقہ میں مجھے دیا ہے۔میرا دماغ اس سے بھیگ گیا ہے۔ یہ میری بھٹی ہے ، کولنگ پلستر ہے۔ یہ میری محبت ہے ، یہ میری آرزو ہے۔میرا دماغ اسے امن کے طور پر جانتا ہے۔ میں بدیہی سکون سے لطف اندوز ہوتا ہوں ، اور میں خوشی سے کھیلتا ہوں۔ دوبارہ پیدا ہونے کا دور میرے لئے ختم ہو گیا ہے ، اور میں خداوند کے ساتھ مل گیا ہوں۔نانک کو گرو کے لفظ کے کلام سے چھیدا گیا ہے۔ راگ گوری مالوا ، پانچواں مہر:ایک آفاقی خالق خدا۔ سچے گرو کی مہربانی سے:خداوند کے نام کا نعرہ لگاؤ۔ اے میرے دوست! آخرت کا راستہ خوفناک اور غدار ہے۔ خدمت کرو ، خدمت کرو ، ہمیشہ خداوند کی خدمت کرو۔ موت تیرے سر پر لٹک رہی ہے۔مقدس سنتوں کے لئے خدمت کرو ، بے لوث خدمت کرو ، اور موت کی نیند کاٹ دیا جائے گا۔بصورت دیگر ، آپ جنت اور جہنم دونوں کے تابع ہیں اور آپ کو پیدائش اور موت کے دائرے میں شامل کیا جائے گا۔ آپ بے معنی آگ کی پوجا ، قربانی کی تقریبات ، زیارتیں اور دیگر رسومات انجام دے سکتے ہیں لیکن آپ کی انا اور برائیوں میں اضافہ ہوگا۔آپ جنت اور جہنم دونوں کے تابع ہیں ، اور آپ کو بار بار جنم لیا جاتا ہے۔ شیوا کا دائرہ ، برہما اور اندرا کے دائرے بھی۔ کہیں بھی مستقل نہیں ہوتا ہے۔خداوند کی خدمت کے بغیر ، کوئی سکون نہیں ہے۔ بے وفا خبط آتا ہے اور دوبارہ جنم لیتا ہےجیسا کہ گرو نے مجھے سکھایا ہے ، اسی طرح میں نے بھی بات کی ہے۔نانک کہتا ہے ، سنو ، لوگو: خداوند کی حمد کا کیترن گاؤ ، اور تمہیں نجات ملے گی۔ راگ گیوری مالا ، پانچواں مہر:ایک آفاقی خالق خدا۔ سچے گرو کی مہربانی سے:ایک بچے کے معصوم ذہن کو اپناتے ہوئے ، مجھے سکون ملا ہے۔خوشی اور غم ، نفع و نقصان ، پیدائش اور موت ، درد اور لذت – یہ سب میرے ہوش میں یکساں ہیں ، چونکہ میں گرو سے ملا تھاجب تک میں نے منصوبوں کا منصوبہ بنایا اور منصوبہ بنایا ، میں مایوسی سے بھر گیا تھا۔جب میں قسم ، کامل گرو سے ملا ، تب مجھے اتنی آسانی سے خوشی ملی۔ چالاکی کے ذریعہ میں نے جتنا زیادہ اعمال انجام دئے تھے ، اتنے ہی مجھ میں قیدیوں کا سر قلم کیا گیا۔جب مقدس سینت نے میرے ماتھے پر اپنا ہاتھ رکھا ، تب میں آزاد ہوا۔جب تک میں نے دعوی کیا ، “میرا ، میرا!” ، میں بدکاری اور بدعنوانی سے گھرا ہوا تھا۔
لیکن جب میں نے اپنے دماغ ، جسم اور عقل کو اپنے رب اور مالک کے لئے وقف کیا تو پھر میں سکون سے سونے لگا۔ جب تک میں بوجھ اٹھاتے ہوئے ساتھ چلتا رہا ، میں جرمانہ ادا کرتا رہا۔لیکن میں نے اس گٹھے کو پھینک دیا ، جب میں کامل گرو سے ملا تھا۔ نانک ، پھر میں نڈر ہوگیاگوری مالا ، پانچواں مہر:میں نے اپنی خواہشات کو ترک کردیا ہے۔ میں نے ان کو ترک کردیا ہے۔میں نے ان کو ترک کردیا ہے۔ گرو سے ملنے ، میں نے ان کو ترک کردیا ہے۔جب سے میں نے کائنات کے رب کی مرضی کے مطابق ہتھیار ڈال دیئے ہیں تب سے ساری سکون ، خوشی ، مسرت اور لذتیں آچکی ہیں۔
مانُ ابھِمانُ دۄئۄُ سمانے
مستکُ ڈارِ گُر پاگِئۄ ॥
سنّپت ہرکھُ ن آپت دۄُکھا
رنّگ ٹھاکُرےَ لاگِئۄ ॥1॥
باس باسری ایکےَ سُیامی
اُدِیان د٘رِسٹاگِئۄ ॥
نِربھءُ بھۓ سنّت بھ٘رمُ ڈارِئۄ
پۄُرن سرباگِئۄ ॥2॥
جۄ کِچھُ کرتےَ کارݨُ کیِنۄ
منِ بُرۄ ن لاگِئۄ ॥
سادھسنّگتِ پرسادِ سنّتن کےَ
سۄئِئۄ منُ جاگِئۄ ॥3॥
جن نانک اۄڑِ تُہاری پرِئۄ
آئِئۄ سرݨاگِئۄ ॥
نام رنّگ سہج رس ماݨے
پھِرِ دۄُکھُ ن لاگِئۄ ॥4॥2॥ 160 ॥
گئُڑی مالا محلا 5॥
پائِیا لالُ رتنُ منِ پائِیا ॥
تنُ سیِتلُ منُ سیِتلُ تھیِیا
ستگُر سبدِ سمائِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
لاتھی بھۄُکھ ت٘رِسن سبھ لاتھی
چِنّتا سگل بِساری ॥
کرُ مستکِ گُرِ پۄُرےَ دھرِئۄ
منُ جیِتۄ جگُ ساری ॥1॥
ت٘رِپتِ اگھاءِ رہے رِد انّترِ
ڈۄلن تے اب چۄُکے ॥
اکھُٹُ خزانا ستِگُرِ دیِیا
تۄٹِ نہی رے مۄُکے ॥2॥
اچرجُ ایکُ سُنہُ رے بھائی
گُرِ ایَسی بۄُجھ بُجھائی ॥
لاہِ پردا ٹھاکُرُ جءُ بھیٹِئۄ
تءُ بِسری تاتِ پرائی ॥3॥
کہِئۄ ن جائی ایہُ اچنّبھءُ
سۄ جانےَ جِنِ چاکھِیا ॥
کہُ نانک سچ بھۓ بِگاسا
گُرِ نِدھانُ رِدےَ لےَ راکھِیا ॥4॥3॥ 161 ॥
گئُڑی مالا محلا 5॥
اُبرت راجا رام کی سرݨی ॥
سرب لۄک مائِیا کے منّڈل
گِرِ گِرِ پرتے دھرݨی ॥1॥ رہاءُ ॥
ساست سِنّم٘رِتِ بید بیِچارے
مہا پُرکھن اِءُ کہِیا ॥
بِنُ ہرِ بھجن ناہی نِستارا
سۄُکھُ ن کِنہۄُنّ لہِیا ॥1॥
تیِنِ بھون کی لکھمی جۄری
بۄُجھت ناہی لہرے ॥
بِنُ ہرِ بھگتِ کہا تھِتِ پاوےَ
پھِرتۄ پہرے پہرے ॥2॥
انِک بِلاس کرت من مۄہن
پۄُرن ہۄت ن کاما ॥
جلتۄ جلتۄ کبہۄُ ن بۄُجھت
سگل ب٘رِتھے بِنُ ناما ॥3॥
ہرِ کا نامُ جپہُ میرے میِتا
اِہےَ سار سُکھُ پۄُرا ॥
سادھسنّگتِ جنم مرݨُ نِوارےَ
نانک جن کی دھۄُرا ॥4॥4॥ 162 ॥
گئُڑی مالا محلا 5॥
مۄ کءُ اِہ بِدھِ کۄ سمجھاوےَ ॥
کرتا ہۄءِ جناوےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
انجانت کِچھُ اِنہِ کمانۄ
جپ تپ کچھۄُ ن سادھا ॥
دہ دِسِ لےَ اِہُ منُ دئُرائِئۄ
کون کرم کرِ بادھا ۔ ॥1॥
من تن دھن بھۄُمِ کا ٹھاکُرُ
ہءُ اِس کا اِہُ میرا ॥
ترجمہ
چونکہ ، میں نے گرو کو مکمل طور پر قبول کیا اور ان کی تعلیمات ، تعریف یا بہتان میرے لئے ایک ہی معنی ہیں چونکہ ، میں نے اپنے خالق سے پیار اختیار کیا ہے ، دولت مجھے مشتعل نہیں کرتی ہے اور بدقسمتی مجھے بھی پریشان نہیں کرتی ہے۔ خالق ساری دنیا ہے۔ میں اسے ہر گھر اور بیابان میں بھی دیکھتا ہوں۔گرو کے فضل سے ، میں نے اپنے شکوک و شبہات سے نجات حاصل کی اور میں بے خوف ہو گیا ہوں۔ اب ، میں جانتا ہوں کہ خدا ہر جگہ پھیل رہا ہے۔ میرا ذہن پریشان نہیں ہوتا جو کچھ بھی خالق کرتا ہے۔گرو کے فضل و کرم اور مخیر حضرات کی صحبت سے ، میرا دماغ دنیاوی لگاؤوں کی نیند سے بیدار ہوگیا۔ نانک نے کہا ، “اے خدا ، میں آپ کا عقیدت مند ہوں اور آپ کی مدد کے لئے آپ کی پناہ میں آیا ہوں۔نام سے راضی ہوں میں بدیہی سکون سے لطف اندوز ہوں۔ کسی قسم کی تکلیف یا تکلیف مجھے اب تکلیف نہیں دیتی ہے۔راگ گیوری مالا ، پانچواں گرو:میں نے اپنے دل میں قیمتی نام حاصل کیا ہے۔گرو کے کلام میں الجھے ہوئے ، میرا جسم و دماغ پرسکون ہو گیا ہے۔
جب سے مایا کی تڑپ ختم ہوگئی ہے ، میری پریشانی دور ہوگئی ہے۔چونکہ گرو نے مجھے برکت دی ہے ، اس لئے میں نے اپنا دماغ فتح کرلیا ہے اور ایسا محسوس ہوتا ہے کہ میں نے پوری دنیا کو فتح کرلیا ہے۔ اب جب کہ میں مزید مایا کے وہم میں مبتلا نہیں ہوں ، میں مستحکم رہتا ہوں اور ڈگمگاتا نہیں ہوں۔سچے گرو نے مجھے نام کا ناقابل خزانہ خزانہ دیا ہے اور یہ کبھی ختم نہیں ہوتا ہے۔ اے ’بھائی ، یہ حیرت سنو! گرو نے مجھے ایسی تفہیم سے نوازا ہے ،کہ وہم کا پردہ ہٹا کر میں نے خدا کو محسوس کیا اور دوسروں کے ساتھ میرا سارا رشک ختم ہوگیا۔یہ ایک حیرت انگیز نعمت ہے جسے بیان نہیں کیا جاسکتا۔ وہ تنہا جانتا ہے ، کون ہےاس کا تجربہ کیا۔نانک کہتے ہیں ، گرو نے میرے دل میں نام کے خزانے کو سمیٹ لیا ہے اور میں روشن خیال ہوں۔راگ گیوری مالا ، پانچواں گرو:صرف خود خدا کی پناہ میں ہی کسی کو مایا کے اثر سے بچایا جاسکتا ہے۔مایا کی گرفت میں ہونے کی وجہ سے ، تمام جہانوں کے باشندے کم روحانی حالت میں ہیں۔ عظیم انسانوں نے شاستوں ، سمرتیوں اور ویدوں کا مطالعہ کیا ہے اور انھوں نے کہا ہے ،کہ کوئی بھی دنیا کے مایا کے مایا میں تیر نہیں سکتا ہے اور خدا کے نام پر غور کیے بغیر امن حاصل نہیں کرسکتا ہے۔ یہاں تک کہ اگر کوئی تینوں جہان کی دولت حاصل کر لے تو لالچ کی لہریں ختم نہیں ہوتی ہیں۔خدا کی عقیدت مند عبادت کے بغیر ، کوئی نہ ختم ہونے والے گھومتا ہے اور ذہنی سکون حاصل نہیں کرسکتا۔ یہاں تک کہ اگر کوئی شخص مختلف دلچسپ تفریحوں میں مشغول ہو ، تو اس کی ہوس پوری نہیں ہوتی ہے۔کوئی ان خواہشات کی آگ میں جلتا رہتا ہے جو کبھی نہیں بجھتے۔ نام پر غور کے علاوہ ، تمام کوششیں بیکار ہیں اے میرے دوستو ، خدا کے نام پر غور کرو ، جو مکمل خوشی کا نچوڑ ہے۔نانک نے ان عقیدت مند کی عاجز خدمت کے سامنے پیش کیا جو مقدس جماعت میں پیدائش اور موت کے چکر سے نجات پاتے ہیں۔راگ گیوری مالا ، پانچواں گرو:
کوئی تخلیق کار کا کردار ادا کرے اور پھر کسی کے ماضی کے اعمال کی وجہ سے مجھے پیدائش اور موت کو برداشت کرنے کے تصور کے ساتھ قائل کرے۔ جہالت سے اگر کوئی شخص کچھ ناجائز کام کرے اور نہ کرےکوئی عقیدت مند عبادت یا توبہ کرو ،اور اس کے دماغ کو مایا کے تعاقب میں گھومنے دیتا ہے ، اس کے ذریعہ کیا مخصوص اعمال ہیں وہ پیدائش اور موت کے چکروں میں بندھا ہوا ہے۔ ایسا شخص فرض کرتا ہے ، میں اپنے دماغ ، جسم ، دولت اور زمین کا مالک ہوں۔ یقین کرو کہ میں ان سے ہوں اور وہ مجھ سے ہیں۔
بھرم مۄہ کچھُ سۄُجھسِ ناہی
اِہ پیَکھر پۓ پیَرا ॥2॥
تب اِہُ کہا کماون پرِیا
جب اِہُ کچھۄُ ن ہۄتا ॥
جب ایک نِرنّجن نِرنّکار پ٘ربھ
سبھُ کِچھُ آپہِ کرتا ॥3॥
اپنے کرتب آپے جانےَ
جِنِ اِہُ رچنُ رچائِیا ॥
کہُ نانک کرݨہارُ ہےَ آپے
ستِگُرِ بھرمُ چُکائِیا ॥4॥5॥ 163 ॥
گئُڑی مالا محلا 5॥
ہرِ بِنُ اور ک٘رِیا بِرتھے ॥
جپ تپ سنّجم کرم کماݨے
اِہِ اۄرےَ مۄُسے ॥1॥ رہاءُ ॥
برت نیم سنّجم مہِ رہتا
تِن کا آڈھُ ن پائِیا ॥
آگےَ چلݨُ ائُرُ ہےَ بھائی
اۄُنْہا کامِ ن آئِیا ॥1॥
تیِرتھِ ناءِ ارُ دھرنی بھ٘رمتا
آگےَ ٹھئُر ن پاوےَ ॥
اۄُہا کامِ ن آوےَ اِہ بِدھِ
اۄہُ لۄگن ہی پتیِیاوےَ ॥2॥
چتُر بید مُکھ بچنی اُچرےَ
آگےَ محلُ ن پائیِۓَ ॥
بۄُجھےَ ناہی ایکُ سُدھاکھرُ
اۄہُ سگلی جھاکھ جھکھائیِۓَ ॥3॥
نانکُ کہتۄ اِہُ بیِچارا
جِ کماوےَ سُ پار گرامی ॥
گُرُ سیوہُ ارُ نامُ دھِیاوہُ
تِیاگہُ منہُ گُمانی ॥4॥6॥ 164 ॥
گئُڑی مالا 5 ॥
مادھءُ ہرِ ہرِ ہرِ مُکھِ کہیِۓَ ॥
ہم تے کچھۄُ ن ہۄوےَ سُیامی
جِءُ راکھہُ تِءُ رہیِۓَ ॥1॥ رہاءُ ॥
کِیا کِچھُ کرےَ کِ کرݨیَہارا
کِیا اِسُ ہاتھِ بِچارے ۔ ॥
جِتُ تُم لاوہُ تِت ہی لاگا
پۄُرن خصم ہمارے ॥1॥
کرہُ ک٘رِپا سرب کے داتے
ایک رۄُپ لِو لاوہُ ॥
نانک کی بیننّتی ہرِ پہِ
اپُنا نامُ جپاوہُ ॥2॥7॥ 165 ॥
راگُ گئُڑی ماجھ محلا 5
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
دیِن دئِیال دمۄدر رائِیا جیءُ ॥
کۄٹِ جنا کرِ سیو لگائِیا جیءُ ॥
بھگت وچھلُ تیرا بِردُ رکھائِیا جیءُ ॥
پۄُرن سبھنی جائی جیءُ ॥1॥
کِءُ پیکھا پ٘ریِتمُ کوݨ سُکرݨی جیءُ ۔ ॥
سنّتا داسی سیوا چرݨی جیءُ ॥
اِہُ جیءُ وتائی بلِ بلِ جائی جیءُ ॥
تِسُ نِوِ نِوِ لاگءُ پائی جیءُ ॥2॥
پۄتھی پنّڈِت بید کھۄجنّتا جیءُ ॥
ہۄءِ بیَراگی تیِرتھِ ناونّتا جیءُ ॥
گیِت ناد کیِرتنُ گاونّتا جیءُ ॥
ہرِ نِربھءُ نامُ دھِیائی جیءُ ॥3॥
بھۓ ک٘رِپال سُیامی میرے جیءُ ॥
پتِت پوِت لگِ گُر کے پیَرے جیءُ ॥
ترجمہ
فانی دنیا کے ساتھ وابستگی کی وجہ سے ، وہ راستبازی کے ساتھ نہیں سوچ سکتا اور مایا کی طوقیں اس کی روحانی پیشرفت کو سست کردیتی ہیں دنیا کی تخلیق سے پہلے ، بغیر روحانی ترقی کیسے ہوسکتی ہےجسم حاصل کیا ہے؟جب صرف بے محل اور بے بنیاد خدا غالب تھا ، اس نے سب کچھ کیاخود. اس اکیلا اپنے اعمال کو جانتا ہے۔نانک کہتے ہیں ، “خدا خود ہی کرنے والا ہے۔ سچے گرو نے میرے جھوٹے کو دور کردیا ہےخیالات ۔ (جیسے دنیاوی چیزوں کی ملکیت میں یقین وغیرہ۔راگ گیوری مالا ، پانچواں گرو:خدا کا دھیان دیئے بغیر ، باقی سارے کام بیکار ہیں۔تلاوت ، توبہ ، خودساختہ اور دیگر رسوم کی خوبیوں کو خوش کرنے کے لئےخدا کی عدالت میں غذا کو تسلیم نہیں کیا جاتا ہے۔ وہ جو روزوں ، روز مرہ کی رسومات اور سادگیوں کے مشاہدہ میں مصروف رہتا ہےیہاں تک کہ ایک پیسہ بھی قابل قدر روحانی فائدہ حاصل نہ کریں۔اے بھائی ، کوئی بھی رسمی کام اس کے بعد کے کسی مقصد کا پورا نہیں ہوگا۔ صرف نام کا مراقبہ وہاں کام کرتا ہے۔ جو شخص زیارت گاہوں پر نہاتا ہے اور پوری دنیا میں گھومتا ہے ، اسے خدا کے دربار میں کوئی پہچان نہیں ملتی ہے۔خدا کے دربار میں اس طرح کا کوئی کام فائدہ مند نہیں ہے۔ وہ صرف لوگوں کو متاثر کرنے کے قابل ہوسکتا ہے۔ یہاں تک کہ میموری سے چاروں وید (ہندو مقدس کتابیں) پڑھ کر بھی ، خدا کی رضا قبول نہیں ہوتی ہے۔کسی کی کوششیں سب بیکار ہیں اگر وہ خدا کے نامکمل نام کے جوہر کو محسوس نہیں کرتا ہے۔نانک نے اس خیال کا اظہار کیا کہ جو شخص خدا کے نام کی دولت حاصل کرتا ہے ، وہ دنیاوی وسوسوں کے تیرنے میں کامیاب وجاتا ہے۔اپنے ذہن کے وہموں کو ترک کریں ، نہایت نرمی کے ساتھ گرو کی تعلیمات پر عمل کریں اور خدا کے نام پر غور کریں۔ راگ گیوری مالا ، پانچواں گرو:اے خدایا ہمارے آقا ، ہمیں برکت دے تاکہ ہم ہمیشہ آپ کے نام کی بات کریں۔اے ہمارے آقا ، ہم خود ہی کچھ کرنے سے قاصر ہیں۔ ہم زندہ رہتے ہیں جیسے آپ ہمارے پیچھے ہو جاتے ہیں۔اے خدا ، ایک شخص کو کیا کرنا چاہئے ؟؛ وہ کیا کرنے کی اہلیت رکھتا ہے اور اس بے بس ہستی کے کنٹرول میں کیا ہے؟اے ’ہمارے کامل آقا ، آپ جو بھی کام کرنے کی ہدایت کرتے ہیں وہ ایک کرتا ہے۔ اے سب کے خیرمقدم ، رحم کریں اور مجھے تنہا آپ سے پیار کرنے کی آرزو کے ساتھ برکت دیں۔اے خدا ، یہ نانک کی دعا ہے ، “براہ کرم مجھے اپنے نام پر غور کریں”۔ راگ گوری ماجہ ، پانچویں گرو:ایک لازوال خدا ، سچے گرو کے فضل سے سمجھا گیا:اے حلیموں پر رحم کرنے والا ، حقدار خدالاکھوں عقیدت مند پیدا کرنے کے بعد ، آپ انہیں اپنی عقیدت مند عبادت میں لائے ہیں۔یہ آپ کی روایت ہے کہ آپ اپنے عقیدت مندوں سے محبت کرتے ہیں۔اے خدا ، آپ نے تمام جگہوں کو مکمل طور پر پھیلادیا۔ نیک عمل کیا ہے جس کے ذریعہ میں پیارے خدا کو دیکھ سکتا ہوں؟
بھ٘رمُ بھءُ کاٹِ کیِۓ نِرویَرے جیءُ ॥
گُر من کی آس پۄُرائی جیءُ ॥4॥
جِنِ ناءُ پائِیا سۄ دھنونّتا جیءُ ॥
جِنِ پ٘ربھُ دھِیائِیا سُ سۄبھاونّتا جیءُ ॥
جِسُ سادھۄُ سنّگتِ تِسُ سبھ سُکرݨی جیءُ ॥
جن نانک سہجِ سمائی جیءُ ॥5॥1॥ 166 ॥
گئُڑی محلا 5 ماجھ ॥
آءُ ہمارےَ رام پِیارے جیءُ ۔ ॥
ریَݨِ دِنسُ ساسِ ساسِ چِتارے جیءُ ॥
سنّت دےءُسنّدیسا پےَ چرݨارے جیءُ ॥
تُدھُ بِنُ کِتُ بِدھِ تریِۓَ جیءُ ۔ ॥1॥
سنّگِ تُمارےَ مےَ کرے اننّدا جیءُ ॥
وݨِ تِݨِ ت٘رِبھوݨِ سُکھ پرماننّدا جیءُ ॥
سیج سُہاوی اِہُ منُ بِگسنّدا جیءُ ॥
پیکھِ درسنُ اِہُ سُکھُ لہیِۓَ جیءُ ॥2॥
چرݨ پکھارِ کری نِت سیوا جیءُ ॥
پۄُجا ارچا بنّدن دیوا جیءُ ॥
داسنِ داسُ نامُ جپِ لیوا جیءُ ॥
بِنءُ ٹھاکُر پہِ کہیِۓَ جیءُ ॥3॥
اِچھ پُنّنی میری منُ تنُ ہرِیا جیءُ ॥
درسن پیکھت سبھ دُکھ پرہرِیا جیءُ ॥
ہرِ ہرِ نامُ جپے جپِ ترِیا جیءُ ॥
اِہ اجرُ نانک سُکھُ سہیِۓَ جیءُ ॥4॥2॥ 167 ॥
گئُڑی ماجھ محلا 5॥
سُݨِ سُݨِ ساجن
من مِت پِیارے جیءُ ۔ ॥
منُ تنُ تیرا
اِہُ جیءُ بھِ وارے جیءُ ॥
وِسرُ ناہی پ٘ربھ پ٘راݨ ادھارے جیءُ ۔ ॥
سدا تیری سرݨائی جیءُ ॥1॥
جِسُ مِلِۓَ منُ جیِوےَ بھائی جیءُ ॥
گُر پرسادی سۄ ہرِ ہرِ پائی جیءُ ॥
سبھُ کِچھُ پ٘ربھ کا
پ٘ربھ کیِیا جائی جیءُ ॥
پ٘ربھ کءُ سد بلِ جائی جیءُ ॥2॥
ایہُ نِدھانُ جپےَ وڈبھاگی جیءُ ॥
نام نِرنّجن ایک لِو لاگی جیءُ ॥
گُرُ پۄُرا پائِیا سبھُ دُکھُ مِٹائِیا جیءُ ॥
آٹھ پہر گُݨ گائِیا جیءُ ॥3॥
رتن پدارتھ ہرِ نامُ تُمارا جیءُ ॥
تۄُنّ سچا ساہُ بھگتُ وݨجارا جیءُ ॥
ہرِ دھنُ راسِ سچُ واپارا جیءُ ॥
جن نانک سد بلِہارا جیءُ ॥4॥3॥ 168 ॥
راگُ گئُڑی ماجھ محلا 5
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
تۄُنّ میرا بہُ ماݨُ کرتے
تۄُنّ میرا بہُ ماݨُ ॥
زۄرِ تُمارےَ سُکھِ وسا
سچُ سبدُ نیِشاݨُ ॥1॥ رہاءُ ॥
سبھے گلا جاتیِیا
سُݨِ کےَ چُپ کیِیا ॥
کد ہی سُرتِ ن لدھیِیا
مائِیا مۄہڑِیا ॥1॥
دےءِ بُجھارت سارتا
سے اکھی ڈِٹھڑِیا ॥
ترجمہ
میرے خوف اور شبہات کو دور کرکے ، گرو نے مجھے دشمنی سے پاک کر دیا ہےگرو نے خدا پر غور کرنے کی میری امید پوری کردی ہےمبارک ہے وہ جو نام کی دولت کو حاصل کرے۔
جو خدا کا دھیان کرتا ہے وہ ممتاز ہوجاتا ہے۔عظمت اس کے اعمال ہیں جو مقدس جماعت میں شامل ہوتا ہے۔اے نانک ، ایسا شخص بدیہی طور پر ابدی خدا میں مل گیا ہے۔راگ گوری ماجہ ، پانچویں گرو:اے میرے پیارے خدا ، آؤ اور میرے دل میں بسر کرو۔میں آپ کو ہمیشہ ، ہر سانس کے ساتھ یاد کرتا ہوں۔میں نہایت عاجزی کے ساتھ گورو کے ذریعہ آپ سے رابطہ کرتا ہوں
کہ تیرے بغیر میں دنیا کے وسوسوں کے سمندر میں تیر نہیں سکتا۔ اے خدا ، تیری صحبت میں رہ کر میں خوشی کی کیفیت سے لطف اٹھاتا ہوں۔ہاں ، میں آپ کو ہر جگہ اور ہر چیز میں دیکھ کر انتہائی خوشی کی کیفیت محسوس کرتا ہوں۔آپ کا استقبال کرنے میں میرا دل خوش ہے۔یہ خوشی صرف آپ کی موجودگی کا احساس کرکے حاصل ہوتی ہے۔ میں ہمیشہ ہی پوری عقیدت کے ساتھ گرو کی تعلیمات پر عمل کرتا ہوں۔میرے لئے یہ میری عبادت ، پھولوں کی نذرانہ اور فرشتوں کا احترام ہے۔میری خواہش ہے کہ آپ کے عقیدت مندوں کا ایک شائستہ نوکر بنوں اور ہمیشہ نام پر غور کریں۔اور ، میں آپ کے عقیدت مندوں سے گذارش کرتا ہوں کہ وہ میری اس دعا کو ، خداوند خدا آپ تک پہنچائے۔میری خواہشات پوری ہوئیں اور میرا دماغ اور جسم پھر سے جوان ہوا۔آپ کی موجودگی کا احساس کرتے ہوئے ، میرے دکھ دور ہوگئے ہیں۔ہمیشہ آپ کے نام پر غور کرنے سے ، میں نے برائیوں کا عالم بحر عبور کیا۔اے نانک ، آپ کی برکت والی موجودگی کا ادراک کر کے ایک ایسا آسمانی نعمت حاصل کرتا ہے جو کبھی ختم نہیں ہوتا ہے۔ راگ گوری ماجہ ، پانچویں گرو:اے میرے پیارے خدا ، میرے دل کے محبوب سنو!اس دماغ ، جسم اور روح کو آپ کی طرف سے نوازا گیا ہے اور میں مکمل طور پر آپ کو آپ کے لئے وقف کرتا ہوں۔ے خدا ، میری زندگی کا سہارا ، میں کبھی بھی آپ کو اور فراموش نہیں کرنا چاہتا ہوں میں ہمیشہ آپ کی پناہ میں رہنا چاہتا ہوں۔خدا کے احساس پر ، ایک روحانی طور پر جوان ہوجاتا ہے۔لیکن اسے صرف گرو کے فضل سے ہی احساس ہوسکتا ہے۔میرے دماغ اور جسم سمیت ہر چیز خدا کی ہے۔ تمام جگہیں اسی کی ہیں۔میں ہمیشہ کے لئے اپنے آپ کو خدا کے لئے وقف کرتا ہوں۔ صرف کوئی ہی خوش قسمت نام کے خزانے پر غور کرتا ہے ،ایسا شخص بالکل ہی خدا کے نام پر مطمئن ہے۔کامل گرو سے ملنے پر ، اس کے سارے دکھ دور ہوجاتے ہیں ،اور وہ ہمیشہ کے لئے ، خدا کی حمد گاتا ہے۔ اے خدا ، تمہارا نام ایک انتہائی قیمتی زیور کی طرح ہے۔آپ ابدی بینکار ہیں اور آپ کا عقیدت مند نام کا سوداگر ہے۔اے خدا ، آپ کا نام سچا سرمایہ ہے اور آپ کا بھکت ہمیشہ نام میں تجارت کرتا ہے۔اے نانک ، میں آپ کو ہمیشہ اور آپ کے عقیدت مندوں کے لئے ہمیشہ کے لئے وقف کرتا ہوں۔ راگ گوری ماجہ ، پانچواں مہر:
ایک لازوال خدا ، سچے گرو کے فضل سے سمجھا گیا:اے خالق ، مجھے آپ پر بہت فخر ہے اور آپ میں مجھے بہت فخر ہے۔تیری قادر مطلق قدرت کی قسم ، میں سکون سے آباد ہوں۔ آپ کا الہی کلام میرے سفر زندگی کی منظوری کی مہر ہے۔ اے خدا ، مایا میں مگن انسان ، نیک لوگوں سے پوری طرح واقف ہےاعمال لیکن ان سے دور رہ گئے ہیں۔مایا سے متاثر ہوکر ، وہ خدا کو جاننے کے لئے عقل حاصل نہیں کرتا ہے۔ یہاں تک کہ واضح اشارے ملنے کے بعد کہ یہاں کوئی ہمیشہ کے لئے نہیں رہے گا ،
کۄئی جِ مۄُرکھُ لۄبھیِیا
مۄُلِ ن سُݨی کہِیا ॥2॥
اِکسُ دُہُ چہُ کِیا گݨی
سبھ اِکتُ سادِ مُٹھی ॥
اِکُ ادھُ ناءِ رسیِئڑا
کا وِرلی جاءِ وُٹھی ॥3॥
بھگت سچے درِ سۄہدے
اند کرہِ دِن راتِ ॥
رنّگِ رتے پرمیسرےَ
جن نانک تِن بلِ جات ॥4॥1॥ 169 ॥
گئُڑی محلا 5 مانْجھ ॥
دُکھ بھنّجنُ تیرا نامُ جی
دُکھ بھنّجنُ تیرا نامُ ॥
آٹھ پہر آرادھیِۓَ
پۄُرن ستِگُر گِیانُ ॥1॥ رہاءُ ॥
جِتُ گھٹِ وسےَ پارب٘رہمُ
سۄئی سُہاوا تھاءُ ॥
جم کنّکرُ نیڑِ ن آوئی
رسنا ہرِ گُݨ گاءُ ॥1॥
سیوا سُرتِ ن جاݨیِیا
نا جاپےَ آرادھِ ॥
اۄٹ تیری جگجیِونا
میرے ٹھاکُر اگم اگادھِ ۔ ॥2॥
بھۓ ک٘رِپال گُسائیِیا
نٹھے سۄگ سنّتاپ ॥
تتی واءُ ن لگئی
ستِگُرِ رکھے آپِ ॥3॥
گُرُ نارائِݨُ دېُ گُرُ
گُرُ سچا سِرجݨہارُ ॥
گُرِ تُٹھےَ سبھ کِچھُ پائِیا
جن نانک سد بلِہار ॥4॥2॥ 170 ॥
گئُڑی ماجھ محلا 5॥
ہرِ رام رام رام راما ॥
جپِ پۄُرن ہۄۓ کاما ॥1॥ رہاءُ ॥
رام گۄبِنّد جپیدِیا
ہۄیا مُکھُ پوِت٘رُ ॥
ہرِ جسُ سُݨیِۓَ جِس تے
سۄئی بھائی مِت٘رُ ॥1॥
سبھِ پدارتھ سبھِ پھلا
سرب گُݨا جِسُ ماہِ ॥
کِءُ گۄبِنّدُ منہُ وِساریِۓَ
جِسُ سِمرت دُکھ جاہِ ॥2॥
جِسُ لڑِ لگِۓَ جیِویِۓَ
بھوجلُ پئیِۓَ پارِ ॥
مِلِ سادھۄُ سنّگِ اُدھارُ ہۄءِ
مُکھ اۄُجل دربارِ ॥3॥
جیِون رۄُپ گۄپال جسُ
سنّت جنا کی راسِ ॥
نانک اُبرے نامُ جپِ
درِ سچےَ ساباسِ ॥4॥3॥ 171 ॥
گئُڑی ماجھ محلا 5॥
میِٹھے ہرِ گُݨ گاءُ جِنّدۄُ
تۄُنّ میِٹھے ہرِ گُݨ گاءُ ॥
سچے سیتی رتِیا
مِلِیا نِتھاوے تھاءُ ॥1॥ رہاءُ ॥
ہۄرِ ساد سبھِ پھِکِیا
تنُ منُ پھِکا ہۄءِ ॥
وِݨُ پرمیسر جۄ کرے
پھِٹُ سُ جیِوݨُ سۄءِ ॥1॥
انّچلُ گہِ کےَ سادھ کا
ترݨا اِہُ سنّسارُ ॥
پارب٘رہمُ آرادھیِۓَ
اُدھرےَ سبھ پروارُ ॥2॥
ساجنُ بنّدھُ سُمِت٘رُ سۄ
ہرِ نامُ ہِردےَ دےءِ ॥
ائُگݨ سبھ مِٹاءِ کےَ
پرئُپکارُ کرےءِ ॥3॥
مالُ خزانا تھیہُ گھرُ
ہرِ کے چرݨ نِدھان ॥
نانک جاچکُ درِ تیرےَ
پ٘ربھ تُدھنۄ منّگےَ دانُ ॥4॥4॥ 172 ॥
ترجمہ
بے وقوف لالچی شخص اس کی بات کو نہیں سنتا جو کہا جارہا ہے۔ یہ چند لوگوں کا سوال ہی نہیں ہے ، مایا کے انہی لالچوں سے پوری دنیا کو دھوکہ دیا جارہا ہے۔شاید ہی کوئی خدا کے نام سے پیار کرتا ہو۔ شاذ و نادر ہی ایسا دل ہے جس میں خدا رہتا ہے۔ خدا کے دربار میں عقیدت مند خوبصورت نظر آتے ہیں اور وہ ہمیشہ خوشی میں رہتے ہیں۔نانک ، میں خود کو خدا کی محبت میں سحر ان لوگوں کے لئے وقف کرتا ہوں۔ راگ گوری ماجہ ، پانچویں گرو:اے خدا ، تیرا نام گناہوں کو ختم کرنے والا ہے۔ ہاں ، تمام گناہوں کو ختم کرنے والا۔کامل سچے گرو کی تعلیم کے بعد ، ہمیں ہر وقت نام پر غور کرنا چاہئے۔
وہ قلب جس میں خدائے بزرگ خدا بستا ہے ، خوبصورت ہوجاتا ہے۔موت کا خوف اس شخص پر اثر انداز نہیں ہوتا جو خدا کی حمد گاتا ہے۔میں نے نہ تو نام پر دھیان دی ہے ، اور نہ ہی عقیدت مند عبادت کی خوبیوں کو سمجھ لیا ہے۔اے ’دنیا کی زندگی ، میرے سمجھ سے باہر اور لامحدود خدا! میں صرف انحصار کرتا ہوں آپ کی مدد. جس پر دنیا کا آقا مہربان ہوجاتا ہے ، اس کے دکھ اور پریشانیاں مٹ جاتی ہیں۔گرو کی حفاظت میں ایک ، کبھی بھی کسی بھی طرح کی اذیت محسوس نہیں کرتا ہے۔گرو مہربان خدا کا مجسمہ ہے اور ہمارا ابدی خالق ہے۔او ’نانک ، جب گرو مہربان ہوگئے تو ایسا لگا جیسے مجھے سب کچھ مل گیا ہے۔ اب ، میں ہمیشہ کے لئے اپنے آپ کو گروور کے لئے وقف کرتا ہوں۔ راگ گوری ماجہ ، پانچویں گرو:تمام کام خدا کے نام پر غور کرنے سے انجام پائے ہیں
خدا کا نام کلام کرنے سے ، تقریر تقویت بخش ہوجاتی ہے۔جو ہمارے ساتھ خدا کی حمد کا تعلق رکھتا ہے ، وہ ہمارا حقیقی دوست ہے۔ وہ جو تمام خوبیوں اور تمام خزانوں کا مالک ہے اورجس پر دھیان دے کر ہماری ساری پریشانییں ختم ہوجائیں ، ہم اس آقا کو کیوں بھول جائیں کائنات کا؟ ہاں ، ہم کیوں اس کو فراموش کریں جس کی تائید سے ہم روحانی طور پر جوان ہوجائیں اور خوفناک عالم بحر عبور کریں؟مقدس جماعت میں نام پر غور کرنے سے ، ہم برائیوں سے نجات پاتے ہیں اور خدا کے دربار میں عزت پاتے ہیں خدا کی حمد اولیاء کی روحانی دولت ہے۔نانک ، نام پر غور کرنے سے ، سنتوں والے لوگوں کو برائیوں اور سے نجات مل جاتی ہے۔خدا کی عدالت میں عزت دی جاتی ہے۔
راگ گوری ماجہ ، پانچویں گرو:اے میری جان ، خدا کی میٹھی تعریفیں گاؤ۔ ہاں ، خدا کی میٹھی تعریفیں گاؤ۔دائمی خدا کی محبت میں رنگین ہونا ، شائستہ لوگوں کو تحفظ فراہم کرتا ہے۔تمام دنیوی ذوق (خدا کی میٹھی تعریفوں کے مقابلے میں) بے چین ہیں۔ ان کے ذریعہ جسم اور دماغ کو بھی تیز تر کردیا جاتا ہے۔خدا کے نام پر غور کیے بغیر کوئی بھی عمل کر کے ملعونہ زندگی بن جاتا ہے۔صرف گورو کی تعلیمات پر عمل کرکے ہی بحروں کا عالمگیر عبور کیا جاسکتا ہے۔خدائے تعالیٰ کا دھیان دیکر پورے کنبے کو برائیوں سے نجات ملتی ہے۔ جو ہمارے دل میں خدا کے نام کو قائم کرنے میں مدد کرتا ہے وہ ایک خیر خواہ اور دوست ہے۔ہمارے سارے گناہوں کو مٹا کر ، وہ ہم پر بڑا احسان کرتا ہے۔ خدا کا نام اصلی خزانہ ، اصل گھر اور حقیقی زندگی ہے۔اے خدا ، نانک آپ سے ‘دولت کی دولت’ مانگتا ہے۔
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
راگُ گئُڑی محلا 9॥
سادھۄ من کا مانُ تِیاگءُ ॥
کامُ ک٘رۄدھُ سنّگتِ دُرجن کی
تا تے اہِنِسِ بھاگءُ ॥1॥ رہاءُ ॥
سُکھُ دُکھُ دۄنۄ سم کرِ جانےَ
ائُرُ مانُ اپمانا ॥
ہرکھ سۄگ تے رہےَ اتیِتا
تِنِ جگِ تتُ پچھانا ॥1॥
اُستتِ نِنّدا دۄئۄُ تِیاگےَ
کھۄجےَ پدُ نِربانا ॥
جن نانک اِہُ کھیلُ کٹھنُ ہےَ
کِنہۄُنّ گُرمُکھِ جانا ॥2॥1॥
گئُڑی محلا 9॥
سادھۄ رچنا رام بنائی ॥
اِکِ بِنسےَ اِک استھِرُ مانےَ
اچرجُ لکھِئۄ ن جائی ॥1॥ رہاءُ ॥
کام ک٘رۄدھ مۄہ بسِ پ٘رانی
ہرِ مۄُرتِ بِسرائی ॥
جھۄُٹھا تنُ ساچا کرِ مانِئۄ
جِءُ سُپنا ریَنائی ॥1॥
جۄ دیِسےَ سۄ سگل بِناسےَ
جِءُ بادر کی چھائی ॥
جن نانک جگُ جانِئۄ مِتھِیا
رہِئۄ رام سرنائی ॥2॥2॥
گئُڑی محلا 9॥
پ٘رانی کءُ ہرِ جسُ منِ نہی آوےَ ॥
اہِنِسِ مگنُ رہےَ مائِیا مےَ
کہُ کیَسے گُن گاوےَ ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
پۄُت میِت مائِیا ممتا سِءُ
اِہ بِدھِ آپُ بنّدھاوےَ ॥
م٘رِگ ت٘رِسنا جِءُ جھۄُٹھۄ اِہُ جگ
دیکھِ تاسِ اُٹھِ دھاوےَ ॥1॥
بھُگتِ مُکتِ کا کارنُ سُیامی
مۄُڑ تاہِ بِسراوےَ ॥
جن نانک کۄٹن مےَ کۄئۄُ
بھجن رام کۄ پاوےَ ॥2॥3॥
گئُڑی محلا 9॥
سادھۄ اِہُ منُ گہِئۄ ن جائی ॥
چنّچل ت٘رِسنا سنّگِ بستُ ہےَ
ېا تے تھِرُ ن رہائی ॥1॥ رہاءُ ॥
کٹھن کرۄدھ گھٹ ہی کے بھیِترِ
جِہ سُدھِ سبھ بِسرائی ॥
رتنُ گِیانُ سبھ کۄ ہِرِ لیِنا
تا سِءُ کچھُ ن بسائی ॥1॥
جۄگی جتن کرت سبھِ ہارے
گُنی رہے گُن گائی ॥
جن نانک ہرِ بھۓ دئِیالا
تءُ سبھ بِدھِ بنِ آئی ॥2॥4॥
گئُڑی محلا 9॥
سادھۄ گۄبِنّد کے گُن گاوءُ ॥
مانس جنمُ امۄلکُ پائِئۄ
بِرتھا کاہِ گواوءُ ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
پتِت پُنیِت دیِن بنّدھ ہرِ
سرنِ تاہِ تُم آوءُ ॥
گج کۄ ت٘راسُ مِٹِئۄ جِہ سِمرت
تُم کاہے بِسراوءُ ۔ ॥1॥
تجِ ابھِمان مۄہ مائِیا پھُنِ
بھجن رام چِتُ لاوءُ ॥
نانک کہت مُکتِ پنّتھ اِہُ
گُرمُکھِ ہۄءِ تُم پاوءُ ॥2॥5॥
گئُڑی محلا 9॥
کۄئۄُ مائی بھۄُلِئۄ منُ سمجھاوےَ ॥
ترجمہ
ایک لازوال خدا ، سچے گرو کے فضل سے سمجھا گیا:راگ گوری ، نویں گرو:او ’سنت پرست لوگو ، اپنے ذہنوں اور اپنے پروردہ غرور کو فخر کریں ہوس اور غصے سے پرہیز کرنا جو شر کی صحبت میں ہونے کی طرح ہے۔وہ جو تکلیف اور خوشی ، عزت اور بے عزتی کو ایک جیسا سمجھتا ہے اورخوشی اور غم سے اوپر اٹھتا ہے ، دنیا میں زندگی کے حقیقی جوہر کو محسوس کرتا ہے۔ وہ چاپلوسی اور بہتان دونوں کو ترک کرتا ہے اور اعلی روحانی حالت کی تلاش کرتا ہے۔جہاں خواہشات کا کوئی اثر نہیں ہوتا۔’نانک ، زندگی کا یہ طرز عمل کافی چیلنجنگ ہے اور کوئی گرو کی تعلیمات کے مطابق اس کی نادر زندگی گزارتا ہے۔راگ گوری ، نویں گرو:او ’اولیاء خدا ، خلق خدا نے تخلیق کا انداز پیدا کیا۔یہ تصور سے بالاتر ہے کہ ہم لوگوں کو روز مرتے ہوئے دیکھتے ہیں لیکن یقین رکھتے ہیں کہ ہم ہمیشہ کے لئے زندہ رہیں گے۔ ہوس ، غصے اور جذباتی لگاؤ کی گرفت میں ، خدا کے وجود کو بھول جاتا ہے۔جیسے خواب میں ، وہ فنا ہوجانے والے جسم کو ہمیشہ کے لئے سمجھتا ہے۔ جو بھی نظر آتا ہے وہ بادل کے سائے کی طرح غائب ہوتا ہے۔اے ’نانک ، جس کو یہ احساس ہو کہ یہ دنیا ایک فریب ہے ، ابدی خدا کی پناہ میں ہے۔ راگ گوری ، نویں گرو:’’ خدا کی حمد کا خیال ‘‘ کسی شخص کے ذہن میں داخل بھی نہیں ہوتا ہے۔وہ ، ہمیشہ مایا میں مگن رہتا ہے۔ مجھے بتاو ، وہ کس طرح کے بارے میں سوچ سکتا ہے
خدا پر غور کرنا اس کے بجائے ، وہ ہمیشہ دنیاوی خواہشات ، کنبہ اور دوستوں سے وابستہ رہتا ہے اور ان کے ساتھ پابند رہتا ہے۔ہرن کے دھوکے کی طرح ، جھوٹے دنیاوی لذتوں کے پیچھے بھاگتا رہتا ہے۔بے وقوف شخص اپنے آقا کو بھول جاتا ہے جو ساری خوشنودی اور آزادی کا اصل ذریعہ ہے۔
اے نانک ، لاکھوں لوگوں میں سے ایک نایاب شخص خدا کی عقیدت مند عبادت سے نوازا ہے۔ راگ گوری ، نویں گرو:او ’سنت پرست افراد ، اس ذہن کو روکا نہیں جاسکتا۔چکناہٹ کی خواہشات اس میں بسر کرتی ہیں اور یہ مستحکم نہیں رہتی ہیں۔ جب دل غصے اور تشدد سے بھر جاتا ہے تو وہ اپنے فیصلے کا احساس کھو دیتا ہے۔اس غضب سے ہر ایک کا قیمتی علم چھین لیا جاتا ہے اور کسی کے عمل پر کوئی قابو نہیں رہتا ہے۔ یوگیوں نے سب کچھ کرنے کی کوشش کی لیکن ناکام رہا۔ علماء نے ان کے طریقوں کی حمایت کی لیکن وہ ناکام رہے۔اے نانک ، جب خدا مہربان ہوجاتا ہے ، تب ذہن پر قابو پانے کی ہر کوشش موثر ہوجاتی ہے۔ راگ گوری ، نویں گرو: ،او ’اولیاء لوگ: کائنات کے مالک کی حمد گاؤ۔آپ کو انمول انسانی زندگی نصیب ہوئی۔ آپ اسے دوسرے صوں میں کیوں ضائع کررہے ہیں؟ خدا گنہگاروں کو پاک کرتا ہے اور عاجز پر رحم کرتا ہے۔ تو ، اس کی پناہ مانگو۔
خدا کا دھیان دینے سے ، یہاں تک کہ ہاتھی کا خوف (فرشتہ ملعون اور ہاتھی میں بدل گیا) بھی دور ہوگیا۔ لہذا ، آپ اسے کیوں بھول جاتے ہیں اپنے مغرور غرور اور مایا سے جذباتی لگاؤ ترک کریں۔ آپ کی توجہ مرکوزخدا کے مراقبہ پر شعورنانک نے کہا ، گورو کی تعلیمات پر عمل کرکے آپ یہ راستہ حاصل کرسکتے ہیں ۔راگ گوری ، نویں گرو:اے والدہ ، کاش کوئی میرے دل و دماغ کو ہدایت دے۔
بید پُران سادھ مگ سُنِ کرِ
نِمکھ ن ہرِ گُن گاوےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
دُرلبھ دیہ پاءِ مانس کی
بِرتھا جنمُ سِراوےَ ॥
مائِیا مۄہ مہا سنّکٹ بن
تا سِءُ رُچ اُپجاوےَ ॥1॥
انّترِ باہرِ سدا سنّگِ پ٘ربھُ
تا سِءُ نیہُ ن لاوےَ ॥
نانک مُکتِ تاہِ تُم مانہُ
جِہ گھٹِ رامُ سماوےَ ॥2॥6॥
گئُڑی محلا 9॥
سادھۄ رام سرنِ بِسراما ॥
بید پُران پڑے کۄ اِہ گُن
سِمرے ہرِ کۄ ناما ॥1॥ رہاءُ ॥
لۄبھ مۄہ مائِیا ممتا پھُنِ
اءُ بِکھِئن کی سیوا ॥
ہرکھ سۄگ پرسےَ جِہ ناہنِ
سۄ مۄُرتِ ہےَ دیوا ॥1॥
سُرگ نرک انّم٘رِت بِکھُ اے سبھ
تِءُ کنّچن ارُ پیَسا ॥
اُستتِ نِنّدا اے سم جا کےَ
لۄبھُ مۄہُ پھُنِ تیَسا ॥2॥
دُکھُ سُکھُ اے بادھے جِہ ناہنِ
تِہ تُم جانءُ گِیانی ॥
نانک مُکتِ تاہِ تُم مانءُ
اِہ بِدھِ کۄ جۄ پ٘رانی ॥3॥7॥
گئُڑی محلا 9॥
من رے کہا بھئِئۄ تےَ بئُرا ۔ ॥
اہِنِسِ ائُدھ گھٹےَ نہی جانےَ
بھئِئۄ لۄبھ سنّگِ ہئُرا ॥1॥ رہاءُ ॥
جۄ تن تےَ اپنۄ کرِ مانِئۄ
ارُ سُنّدر گ٘رِہ ناری ॥
اِن میَں کچھُ تیرۄ رے ناہنِ
دیکھۄ سۄچ بِچاری ॥1॥
رتن جنمُ اپنۄ تےَ ہارِئۄ
گۄبِنّد گتِ نہی جانی ॥
نِمکھ ن لیِن بھئِئۄ چرنن سِنْءُ
بِرتھا ائُدھ سِرانی ॥2॥
کہُ نانک سۄئی نرُ سُکھیِیا
رام نام گُن گاوےَ ॥
ائُر سگل جگُ مائِیا مۄہِیا
نِربھےَ پدُ نہی پاوےَ ॥3॥8॥
گئُڑی محلا 9 ॥
نر اچیت پاپ تے ڈرُ رے ॥
دیِن دئِیال سگل بھےَ بھنّجن
سرنِ تاہِ تُم پرُ رے ॥1॥ رہاءُ ॥
بید پُران جاس گُن گاوت
تا کۄ نامُ ہیِۓَ مۄ دھرُ رے ॥
پاون نامُ جگتِ مےَ ہرِ کۄ
سِمرِ سِمرِ کسمل سبھ ہرُ رے ॥1॥
مانس دیہ بہُرِ نہ پاوےَ
کچھۄُ اُپاءُ مُکتِ کا کرُ رے ॥
نانک کہت گاءِ کرُنا مےَ
بھوساگر کےَ پارِ اُترُ رے ॥2॥9॥ 251 ॥
راگُ گئُڑی اسٹپدیِیا محلا 1 گئُڑی گُیاریری
ੴ ستِنامُ کرتا پُرکھُ گُرپ٘رسادِ ॥
نِدھِ سِدھِ نِرمل نامُ بیِچارُ ॥
پۄُرن پۄُرِ رہِیا بِکھُ مارِ ॥
ت٘رِکُٹی چھۄُٹی بِمل مجھارِ ॥
ترجمہ
یہاں تک کہ ویدوں ، پرانا (مقدس صحیفوں) اور سنتوں کے بیان کردہ طریقوں کو سننے کے بعد بھی ، وہ ایک لمحہ کے لئے بھی خدا کی حمد نہیں گاتا ہے۔ اس انسانی جسم کو حاصل کرنا اتنا مشکل حاصل کرنے کے بعد ، وہ اسے گزرنے دے رہا ہے۔بیکاریہ دنیا مایا سے دہکتی ہوئی ہے پھر بھی اسے اس سے پیار ہے۔ وہ خدا کے لئے محبت کو قائم نہیں کرتا ، جو ہمیشہ قریب ہی ہوتا ہے ، اندر اور باہر۔
اے ’نانک ، صرف اسی شخص کو مایا کی گرفت سے آزاد سمجھو جس کیدل خدا سے معمور ہے
راگ گوری ، نویں گرو:اے ’مخلص لوگو ، خدا کی پناہ میں امن ہے۔(مقدس کتابیں ، جیسے) ویدوں اور پرانوں کو پڑھنے کا اصل فائدہ یہ ہے کہ کوئی خدا کے نام پر جوش و خروش کے ساتھ غور کرنا شروع کر دیتا ہے۔ لالچ ، مایا سے محبت ، جذباتی لگاؤ ، شرارت:کوئی بھی جو ان برائیوں سے یا خوشی یا تکلیف سے متاثر نہیں ہوتا ہے وہ ایک ہےخدا کا مجسمہ جنت اور جہنم ، حیرت انگیز امرت اور زہر ، سونا اور تانبا ، یہ سب ایک ایسے شخص کے لئے یکساں ہیں۔اس شخص کے لئے ، تعریف اور بہتان ایک جیسے ہیں ، جیسے لالچ اور لگاؤ۔ اس شخص پر خدائی حکمت پر غور کریں جو خوشی یا غم کا پابند نہیں ہے۔اے نانک ، جو شخص زندگی میں اس طرح کے طرز عمل کو اپناتا ہے ، اسے دنیاوی بندھنوں اور برائیوں سے آزاد سمجھتا ہے۔ راگ گوری ، نویں گرو:دماغ ، تم کیوں پاگل ہو رہے ہو؟
کسی کو یہ احساس نہیں ہوتا ہے کہ اس کی زندگی کا دن اور رات کم ہو رہا ہے اور لالچ کی تلاش میں وہ روحانی زوال کا شکار ہے۔آپ کا جسم اور اپنی خوبصورت بیوی جسے آپ اپنا ہی مانتے ہیں ،
ان میں سے کوئی بھی آپ کو ہمیشہ کے لئے قائم رکھنے کے لئے نہیں ہے۔ غور سے سوچو آپ نے اپنی قیمتی انسانی زندگی کھو دی ہے اور مالک کائنات کے جوہر کو نہیں سمجھا ہے۔یہاں تک کہ ایک لمحہ کے لئے بھی ، آپ نے خود کو خدا کی عبادت پرستی میں مبتلا نہیں کیا اور آپ نے اپنی زندگی ضائع کردی۔ نانک کہتے ہیں ، وہ شخص امن میں رہتا ہے جو خدا کی حمد گاتا ہے۔باقی دنیا مایا کے لالچ میں دھوکہ کھا چکی ہے اور روحانی حالت کو کبھی حاصل نہیں کرتی جہاں خوف نہیں ہوتا ہےراگ گوری ، نویں گرو:اے ’روحانی طور پر جاہل شخص ، گناہوں سے ڈرو۔اپنے آپ کو گناہوں سے بچانے کے لئے ، خدا کی پناہ مانگیں جو ہر طرح کے خوفوں کو دور کرنے والوں پر مہربان ہے۔خدا کے نام کو اپنے دل میں داخل کرو جس کی تعریف مقدس کتابوں مثلا ویدوں اور پرانوں میں گایا جاتا ہے (لکھا ہوا ہے)۔ہاں ، دنیا میں پاک کرنے والا خدا کا نام ہے۔ اس پر غور کریں اور اپنے گناہوں کو مٹا دیں۔
آپ کو دوبارہ انسانی زندگی نہیں ملے گی۔ آزادی کے حصول کے لئے کچھ کوشش کریں!نانک نے کہا ، ’’ اے انسان اس رحمدل خدا کی حمد گائے اور خوفناک دنیاوی سمندر میں تیرے۔ راگ گوری گورائری: ، اشپدیس ، پہلا گرو:ایک ابدی خدا ، تخلیقی وجود اور گرو کے فضل سے اس کا احساس ہوا:
اپنے آپ میں قطعی نام پر غور کرنا ایک خزانہ اور معجزاتی قوت ہے۔زہریلی مایا سے میری لگاؤ ختم ہونے کے بعد ، مجھے اس کی موجودگی کا احساس ہےکامل خدا ہر جگہ۔میں مایا کے تین طریقوں (طاقت ، نائب اور فضیلت) سے اوپر اٹھ گیا ہوں۔
گُرِ کی متِ جیِءِ آئی کارِ ॥1॥
اِن بِدھِ رام رمت منُ مانِیا ॥
گِیان انّجنُ گُر سبدِ پچھانِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
اِکُ سُکھُ مانِیا سہجِ مِلائِیا ॥
نِرمل باݨی بھرمُ چُکائِیا ॥
لال بھۓ سۄُہا رنّگُ مائِیا ॥
ندرِ بھئی بِکھُ ٹھاکِ رہائِیا ॥2॥
اُلٹ بھئی جیِوت مرِ جاگِیا ॥
سبدِ روے منُ ہرِ سِءُ لاگِیا ॥
رسُ سنّگ٘رہِ بِکھُ پرہرِ تِیاگِیا ॥
بھاءِ بسے جم کا بھءُ بھاگِیا ॥3॥
ساد رہے بادنّ اہنّکارا ॥
چِتُ ہرِ سِءُ راتا حُکمِ اپارا ॥
زاتِ رہے پتِ کے آچارا ॥
د٘رِسٹِ بھئی سُکھُ آتم دھارا ॥4॥
تُجھ بِنُ کۄءِ ن دیکھءُ میِتُ ॥
کِسُ سیوءُ کِسُ دیوءُ چیِتُ ۔ ॥
کِسُ پۄُچھءُ کِسُ لاگءُ پاءِ ۔ ॥
کِسُ اُپدیسِ رہا لِو لاءِ ॥5॥
گُر سیوی گُر لاگءُ پاءِ ॥
بھگتِ کری راچءُ ہرِ ناءِ ॥
سِکھِیا دیِکھِیا بھۄجن بھاءُ ॥
حُکمِ سنّجۄگی نِج گھرِ جاءُ ॥6॥
گرب گتنّ سُکھ آتم دھِیانا ॥
جۄتِ بھئی جۄتی ماہِ سمانا ॥
لِکھتُ مِٹےَ نہی سبدُ نیِشانا ॥
کرتا کرݨا کرتا جانا ॥7॥
نہ پنّڈِتُ نہ چتُرُ سِیانا ॥
نہ بھۄُلۄ نہ بھرمِ بھُلانا ॥
کتھءُ ن کتھنی حُکمُ پچھانا ॥
نانک گُرمتِ سہجِ سمانا ॥9॥1॥
گئُڑی گُیاریری محلا 1॥
منُ کُنّچرُ کائِیا اُدِیانےَ ॥
گُرُ انّکسُ سچُ سبدُ نیِشانےَ ॥
راج دُیارےَ سۄبھ سُ مانےَ ॥1॥
چتُرائی نہ چیِنِیا جاءِ ॥
بِنُ مارے کِءُ قیِمتِ پاءِ ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
گھر مہِ انّم٘رِتُ تسکرُ لیئی ॥
ننّناکارُ ن کۄءِ کریئی ॥
راکھےَ آپِ وڈِیائی دیئی ॥2॥
نیِل انیِل اگنِ اِک ٹھائی ॥
جلِ نِوری گُرِ بۄُجھ بُجھائی ॥
منُ دے لیِیا رہسِ گُݨ گائی ॥3॥
جیَسا گھرِ باہرِ سۄ تیَسا ॥
بیَسِ گُپھا مہِ آکھءُ کیَسا ۔ ॥
ساگرِ ڈۄُگرِ نِربھءُ ایَسا ॥4॥
مۄُۓ کءُ کہُ مارے کئُنُ ۔ ॥
نِڈرے کءُ کیَسا ڈرُ کونُ ۔ ॥
سبدِ پچھانےَ تیِنے بھئُن ॥5॥
جِنِ کہِیا تِنِ کہنُ وکھانِیا ॥
جِنِ بۄُجھِیا تِنِ سہجِ پچھانِیا ॥
دیکھِ بیِچارِ میرا منُ مانِیا ॥6॥
کیِرتِ صۄُرتِ مُکتِ اِک نائی ॥
تہی نِرنّجنُ رہِیا سمائی ॥
نِج گھرِ بِیاپِ رہِیا نِج ٹھائی ॥7॥
اُستتِ کرہِ کیتے مُنِ پ٘ریِتِ ॥
ترجمہ
گرو کی تعلیمات کی برکت سے میری جان کو فائدہ مند ثابت ہوا ہے۔اس طرح سے سراسر خدا کا دھیان دے کر ، میرا دماغ اس کی مرضی کو قبول کرچکا ہے اور پوری طرح راضی ہے۔میں نے روحانی حکمت کا مرہم حاصل کیا ہے ، گرو کے لفظ کے کلام کو پہچان لیا ہے۔ ایک ہی رب کے ساتھ ملا ہوا ، میں بدیہی سکون سے لطف اندوز ہوتا ہوں۔کلام کی تقویت بخش بنی کے ذریعے ، میرے شکوک و شبہات دور ہوگئے ہیں۔مایا کے پیلا رنگ کے بجائے ، میں لارڈز کے پیار کے گہرے رنگت میں رنگین ہوں۔لارڈز آف گرنس آف گریس کے ذریعہ ، زہر کو ختم کردیا گیا ہے۔ جب میں مڑ گیا ، اور جب تک زندہ رہا ، مر گیا ، میں بیدار ہوا۔کلمہ الوداع کے نعرے لگاتے ہوئے ، میرا دماغ رب سے وابستہ ہے۔میں نے خداوند کی عظمت جوہر میں جمع ہوکر زہر نکال دیا ہے۔اس کی محبت میں قائم رہتے ہوئے موت کا خوف بھاگ گیا ہے۔میرا لذت کا ذائقہ تنازعہ اور غرور کے ساتھ ختم ہوا۔میرا ہوش خداوند سے مطابقت رکھتا ہے ، لامحدود کے حکم سے۔دنیاوی فخر اور اعزاز کے لئے میرا تعاقب ختم ہوچکا ہے۔جب اس نے مجھے اپنے فضل وکرم سے نوازا ، میرے اندر امن قائم ہوا
روح ۔تیرے بغیر مجھے کوئی دوست نظر نہیں آتا۔میں کس کی خدمت کروں؟ میں کس کو اپنا ہوش وقف کروں؟میں کس سے پوچھوں؟ میں کس کے قدموں پر گروں؟کس کی تعلیمات سے میں اس کی محبت میں مشغول رہوں گا؟ میں گرو کی خدمت کرتا ہوں ، اور میں گرو کے پاؤں پر گرتا ہوں۔
میں اسی کی عبادت کرتا ہوں ، اور میں خداوند کے نام میں مشغول ہوں۔رب کی محبت میری ہدایت ، واعظ اور کھانا ہے۔خداوند کے حکم سے منسلک ، میں اپنے اندرونی نفس کے گھر میں داخل ہوا ہوں۔ فخر کے معدوم ہونے کے بعد ، میری روح کو سکون اور مراقبہ ملا ہے۔الہی نور چمک اٹھی ہے ، اور میں نور میں مشغول ہوں۔پہلے سے طے شدہ تقدیر کو مٹایا نہیں جاسکتا۔ شاد میرا بینر اور اشارہ ہے۔میں خالق ، اس کی تخلیق کو جانتا ہوں۔ میں کوئی سیکھا پنڈت نہیں ہوں ، میں ہوشیار یا عقلمند نہیں ہوں۔میں بھٹکتا نہیں ہوں؛ میں شک کی وجہ سے گمراہ نہیں ہوں۔میں خالی تقریر نہیں کرتا؛ میں نے اس کے حکم کے حکم کو پہچان لیا ہے۔نانک گرو کی تعلیمات کے ذریعہ بدیہی سکون میں جکڑے ہوئے ہیں۔ گوری گواراری ، پہلا مہر:دماغ جسم کے جنگل میں ایک ہاتھی ہے۔گرو کنٹرولنگ اسٹک ہے۔ جب سچ انبادیہ کا اطلاق ہوتا ہے تو ، خدا کا بادشاہ کے دربار میں اعزاز حاصل ہوتا ہے۔ || 1 ||
ہوشیار چالوں سے وہ نہیں جانا جاسکتا۔ذہن کو دبے ہوئے بغیر ، اس کی قیمت کا اندازہ کیسے لگایا جاسکتا ہے۔نفس کے گھر میں امبراتی امرت ہے ، جسے چوروں نے چوری کیا ہے۔ان سے کوئی نہیں کہہ سکتا۔وہ خود ہماری حفاظت کرتا ہے ، اور ہمیں عظمت سے نوازتا ہے۔ دماغ کی نشست پر اربوں ، لاتعداد اربوں خواہش کی آگ ہے۔وہ صرف سمجھ کے پانی سے بجھ جاتے ہیں ، گرو کی وسعت سے
اپنے ذہن کی پیش کش کرتے ہوئے ، میں نے اسے حاصل کرلیا ، اور میں خوشی خوشی اس کی حمد گاتا ہوں۔جس طرح وہ نفس کے گھر کے اندر ہے اسی طرح وہ بھی ماوراء ہے۔لیکن میں اس کو کیسے غار میں بیٹھا بیان کرسکتا ہوں؟نڈر رب سمندروں میں ہے جس طرح وہ پہاڑوں میں ہے۔ مجھے بتاؤ ، جو پہلے ہی مردہ ہے اسے کون مار سکتا ہے؟اسے کیا ڈر ہے؟ نڈر کو کون ڈرا سکتا ہے؟وہ تینوں جہانوں میں کلام الشریف کو پہچانتا ہے۔ جو بولتا ہے ، محض تقریر کرتا ہے۔لیکن جو سمجھتا ہے ، اسے بدیہی احساس ہوتا ہے۔اس کو دیکھ کر اور اس پر غور کرتے ہوئے ، میرا دماغ ہتھیار ڈال دیتا ہے۔ تعریف ، خوبصورتی اور آزادی ایک ہی نام میں ہیں۔اس میں ، بے عیب رب کامل اور پھیل رہا ہے۔وہ نفس کے گھر میں ، اور اپنی ذات میں رہتا ہے۔ بہت سارے خاموش بابا بڑے پیار سے اس کی تعریف کرتے ہیں۔
تنِ منِ سۄُچےَ ساچُ سُ چیِتِ ॥
نانک ہرِ بھجُ نیِتا نیِتِ ॥8॥2॥
گئُڑی گُیاریری محلا 1॥
نا منُ مرےَ ن کارجُ ہۄءِ ॥
منُ وسِ دۄُتا دُرمتِ دۄءِ ॥
منُ مانےَ گُر تے اِکُ ہۄءِ ॥1॥
نِرگُݨ رامُ گُݨہ وسِ ہۄءِ ॥
آپُ نِوارِ بیِچارے سۄءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
منُ بھۄُلۄ بہُ چِتےَ وِکارُ ॥
منُ بھۄُلۄ سِرِ آوےَ بھارُ ॥
منُ مانےَ ہرِ ایکنّکارُ ॥2॥
منُ بھۄُلۄ مائِیا گھرِ جاءِ ॥
کامِ بِرۄُدھءُ رہےَ ن ٹھاءِ ॥
ہرِ بھجُ پ٘راݨی رسن رساءِ ॥3॥
گیَور ہیَور کنّچن سُت ناری ॥4॥
بہُ چِنّتا پِڑ چالےَ ہاری ॥
جۄُۓَ کھیلݨُ کاچی ساری ॥4॥
سنّپءُ سنّچی بھۓ وِکار ॥
ہرکھ سۄک اُبھے دروارِ ॥
سُکھُ سہجے جپِ رِدےَ مُرارِ ॥5॥
ندرِ کرے تا میلِ مِلاۓ ॥
گُݨ سنّگ٘رہِ ائُگݨ سبدِ جلاۓ ॥
گُرمُکھِ نامُ پدارتھُ پاۓ ॥6॥
بِنُ ناوےَ سبھ دۄُکھ نِواسُ ॥
منمُکھ مۄُڑ مائِیا چِت واسُ ॥
گُرمُکھِ گِیانُ دھُرِ کرمِ لِکھِیاسُ ॥7॥
منُ چنّچلُ دھاوتُ پھُنِ دھاوےَ ॥
ساچے سۄُچے میَلُ ن بھاوےَ ॥
نانک گُرمُکھِ ہرِ گُݨ گاوےَ ॥8॥3॥
گئُڑی گُیاریری محلا 1॥
ہئُمےَ کرتِیا نہ سُکھُ ہۄءِ ॥
منمتِ جھۄُٹھی سچا سۄءِ ॥
سگل بِگۄُتے بھاوےَ دۄءِ ॥
سۄ کماوےَ دھُرِ لِکھِیا ہۄءِ ॥1॥
ایَسا جگُ دیکھِیا جۄُیاری ॥
سبھِ سُکھ ماگےَ نامُ بِساری ॥1॥ رہاءُ ॥
ادِسٹُ دِسےَ تا کہِیا جاءِ ॥
بِنُ دیکھے کہݨا بِرتھا جاءِ ॥
گُرمُکھِ دیِسےَ سہجِ سُبھاءِ ॥
سیوا سُرتِ ایک لِو لاءِ ॥2॥
سُکھُ مانْگت دُکھُ آگل ہۄءِ ॥
سگل وِکاری ہارُ پرۄءِ ॥
ایک بِنا جھۄُٹھے مُکتِ ن ہۄءِ ॥
کرِ کرِ کرتا دیکھےَ سۄءِ ॥3॥
ت٘رِسنا اگنِ سبدِ بُجھاۓ ॥
دۄُجا بھرمُ سہجِ سُبھاۓ ॥
گُرمتی نامُ رِدےَ وساۓ ॥
ساچی باݨی ہرِ گُݨ گاۓ ॥4॥
تن مہِ ساچۄ گُرمُکھِ بھاءُ ॥
نام بِنا ناہی نِج ٹھاءُ ॥
پ٘ریم پرائِݨ پ٘ریِتم راءُ ॥
ندرِ کرےَ تا بۄُجھےَ ناءُ ॥5॥
مائِیا مۄہُ سرب زنّجالا॥
منمُکھ کُچیِل کُچھِت بِکرالا ॥
ستِگُرُ سیوے چۄُکےَ زنّجالا ॥
انّم٘رِت نامُ سدا سُکھُ نالا ॥6॥
گُرمُکھِ بۄُجھےَ ایک لِو لاۓ ॥
نِج گھرِ واسےَ ساچِ سماۓ ॥
جنّمݨُ مرݨا ٹھاکِ رہاۓ ॥
پۄُرےَ گُر تے اِہ متِ پاۓ ॥1॥
کتھنی کتھءُ ن آوےَ اۄرُ ॥
ترجمہ
ان کے جسم و دماغ پاک ہوجاتے ہیں ، کیوں کہ وہ سچے رب کو اپنے شعور میں سماتے ہیں اے نانک ، ہر روز ، رب کا دھیان کرو۔ گوری گواراری ، پہلا مہر:دماغ مرتا نہیں ہے ، لہذا کام پورا نہیں ہوتا ہے۔دماغ بد عقل اور دوغلے شیطانوں کی طاقت میں ہے۔لیکن جب ذہن ہتھیار ڈال دیتا ہے تو گرو کے ذریعہ ، یہ ایک ہوجاتا ہے۔ خداوند متعال صفات کے بغیر ہے ، صفات کی صفتیں اس کے ماتحت ہیں۔وہ جو اپنی انا کو ختم کرتا ہے اور اسی پر غور کرتا ہے۔ دھوکہ باز ذہن ہر طرح کی بدعنوانی کے بارے میں سوچتا ہے۔جب ذہن دھوکہ کھا جاتا ہے تو ، برائی کا بوجھ سر پر آجاتا ہے۔لیکن جب دماغ رب کے سامنے ہتھیار ڈال دیتا ہے ، تو اسے واحد اور واحد رب کا احساس ہوجاتا ہے۔
دھوکہ دہی والا دماغ مایا کے گھر میں داخل ہوتا ہے۔جنسی خواہش میں مگن رہتا ہے ، یہ مستحکم نہیں رہتا ہے۔اے بشر ، اپنی زبان سے خداوند کا نام پیار سے باندھ۔ ہاتھی ، گھوڑے ، سونا ، بچے اور شریک حیات- ان سب کے فکرمند امور میں ، لوگ کھیل ہار کر چلے جاتے ہیں۔شطرنج کے کھیل میں ان کے ٹکڑے اپنی منزل تک نہیں پہنچ پاتے ہیں۔ وہ دولت جمع کرتے ہیں ، لیکن اس سے صرف برائی ہی آتی ہے۔خوشی اور درد دروازے میں کھڑا ہے۔بدیہی سکون دل کے اندر ، خداوند کا دھیان دے کر آتا ہے۔ جب خداوند کریم اپنی نظروں سے نوازتا ہے ، تب وہ ہمیں اپنے اتحاد میں جوڑ دیتا ہے۔کلام الوجود کے ذریعہ ، خوبیوں کو جمع کیا جاتا ہے ، اور برتاؤ ہوتے ہیں جل گیا۔گورمک رب کا نام ، نام کا خزانہ حاصل کرتا ہے۔ نام کے بغیر ، سب تکلیف میں رہتے ہیں۔بے وقوف ، خود غرض منمخ کا شعور مایا کا ٹھکانہ ہے۔پہلے سے طے شدہ تقدیر کے مطابق گورمک روحانی حکمت حاصل کرتا ہے۔ چکرا دماغ دماغی کاموں کے بعد مسلسل چلتا ہے۔خالص سچا رب غلاظت سے راضی نہیں ہوتا ہے۔نانک ، گورمک رب کی حمد گاتا ہے۔گوری گواراری ، پہلا مہر:مغروریت میں کام کرنے سے ، امن نہیں ملتا ہے۔دماغ کی عقل جھوٹی ہے۔ صرف رب ہی سچا ہے۔وہ سب جو دقلیت کو پسند کرتے ہیں برباد ہوگئے۔لوگ جیسا کہ وہ پہلے سے مقرر ہیں عمل کرتے ہیں۔ میں نے دنیا کو ایسا جوا باز بنتے دیکھا ہے۔سب لوگ سلامتی کی درخواست کرتے ہیں ، لیکن وہ خداوند کے نام کو بھول جاتے ہیں۔ اگر دیکھے ہوئے رب کو دیکھا جاسکتا ہے ، تو پھر وہ بیان کیا جاسکتا ہے۔اسے دیکھے بغیر ، ساری تفصیل بیکار ہے۔گورمک اسے بدیہی آسانی سے دیکھتا ہے۔لہذا ایک ہی رب کی خدمت کرو ، بیداری کے ساتھ۔ لوگ امن کی بھیک مانگتے ہیں ، لیکن انہیں سخت تکلیف ہوتی ہے۔یہ سب کرپشن کا چادر باندھا رہے ہیں۔آپ جھوٹے ہیں – ایک کے بغیر ، آزادی نہیں ہے۔خالق نے مخلوق کو پیدا کیا ، اور وہ اس پر نگاہ رکھتا ہے۔ خواہش کی آگ کلام کلام سے بجھتی ہے۔دلیت اور شک خود بخود ختم ہوجاتے ہیں۔گرو کی تعلیمات کے بعد ، نام دل میں رہتا ہے۔اس کی بنی کے سچی کلام کے ذریعہ ، خداوند کی حمد گاؤ۔ سچا رب اس گورمک کے جسم کے اندر رہتا ہے جو اس سے محبت کا جذبہ رکھتا ہے۔نام کے بغیر ، کسی کو بھی اپنی جگہ حاصل نہیں ہوتی۔محبوب لارڈ کنگ محبت کے لئے وقف ہے۔گر وہ اپنی نظروں سے نوازتا ہے تو ہمیں اس کے نام کا احساس ہوتا ہے۔ مایا سے جذباتی لگاؤ پوری طرح سے الجھا ہوا ہے۔نفس نفس غلیظ ، ملعون اور خوفناک ہے۔سچے گرو کی خدمت کرتے ہوئے ، یہ الجھاؤ ختم ہوجاتے ہیں۔نام کے حیرت انگیز امرت میں ، آپ دیرپا امن میں رہیں گے۔ گورکھم ایک ہی رب کو سمجھتے ہیں ، اور اس کے لئے محبت میں لگ جاتے ہیں۔وہ اپنے اندرونی مخلوق کے گھر میں رہتے ہیں ، اور سچے رب میں مل جاتے ہیں۔یدائش اور موت کا چکر ختم ہوگیا۔یہ تفہیم کامل گرو سے حاصل کی گئی ہے۔ تقریر کرتے ہوئے اس کی کوئی انتہا نہیں ہوتی۔
گُرُ پُچھِ دیکھِیا ناہی درُ ہۄرُ ॥
دُکھُ سُکھُ بھاݨےَ تِسےَ رضاءِ ॥
نانکُ نیِچُ کہےَ لِو لاءِ ॥8॥4॥
گئُڑی محلا 1॥
دۄُجی مائِیا جگت چِت واسُ
کام ک٘رۄدھ اہنّکار بِناسُ ॥1॥
دۄُجا کئُݨُ کہا نہی کۄئی ॥
سبھ مہِ ایکُ نِرنّجنُ سۄئی ॥1॥ رہاءُ ॥
دۄُجی دُرمتِ آکھےَ دۄءِ ॥1॥
آوےَ جاءِ مرِ دۄُجا ہۄءِ ॥2॥
دھرݨِ گگن نہ دیکھءُ دۄءِ ॥
ناری پُرکھ سبائی لۄءِ ॥3॥
روِ سسِ دیکھءُ دیِپک اُجِیالا ॥
سرب نِرنّترِ پ٘ریِتمُ بالا ॥4॥
کرِ کِرپا میرا چِتُ لائِیا ॥
ستِگُرِ مۄ کءُ ایکُ بُجھائِیا ॥4॥
ایکُ نِرنّجنُ گُرمُکھِ جاتا ॥
دۄُجا مارِ سبدِ پچھاتا ॥6॥
ایکۄ حُکمُ ورتےَ سبھ لۄئی ॥
ایکسُ تے سبھ اۄپتِ ہۄئی ॥1॥
راہ دۄوےَ خصمُ ایکۄ جاݨُ ॥
گُر کےَ سبدِ حُکمُ پچھاݨُ ॥8॥
سگل رۄُپ ورن من ماہی ॥
کہُ نانک ایکۄ سالاحی ॥9॥5॥
گئُڑی محلا 1॥
ادھِیاتم کرم کرے تا ساچا ॥
مُکتِ بھیدُ کِیا جاݨےَ کاچا ۔ ॥1॥
ایَسا جۄگی جُگتِ بیِچارےَ ॥
پنّچ مارِ ساچُ اُرِ دھارےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
جِس کےَ انّترِ ساچُ وساوےَ ॥
جۄگ جُگتِ کی قیِمتِ پاوےَ ॥2॥
روِ سسِ ایکۄ گ٘رِہ اُدِیانےَ ॥
کرݨی کیِرتِ کرم سمانےَ ॥3॥
ایک سبد اِک بھِکھِیا ماگےَ ॥
گِیانُ دھِیانُ جُگتِ سچُ جاگےَ ॥4॥
بھےَ رچِ رہےَ ن باہرِ جاءِ ॥
قیِمتِ کئُݨ رہےَ لِو لاءِ ॥5॥
آپے میلے بھرمُ چُکاۓ ॥
گُر پرسادِ پرم پدُ پاۓ ॥6॥
گُر کی سیوا سبدُ ویِچارُ ॥
ہئُمےَ مارے کرݨی سارُ ॥7॥
جپ تپ سنّجم پاٹھ پُراݨُ ॥
کہُ نانک اپرنّپر مانُ ॥8॥6॥
گئُڑی محلا 1॥
کھِما گہی ب٘رتُ سیِل سنّتۄکھنّ ॥
رۄگُ ن بِیاپےَ نا جم دۄکھنّ ॥
مُکت بھۓ پ٘ربھ رۄُپ ن ریکھنّ ॥1॥
جۄگی کءُ کیَسا ڈرُ ہۄءِ ۔ ॥
رۄُکھِ بِرکھِ گ٘رِہِ باہرِ سۄءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
نِربھءُ جۄگی نِرنّجنُ دھِیاوےَ ॥
اندِنُ جاگےَ سچِ لِو لاوےَ ॥
سۄ جۄگی میرےَ منِ بھاوےَ ॥2॥
کالُ جالُ ب٘رہم اگنی جارے ॥
جرا مرݨ گتُ گربُ نِوارے ॥
آپِ ترےَ پِتری نِستارے ॥3॥
ستِگُرُ سیوے سۄ جۄگی ہۄءِ ॥
بھےَ رچِ رہےَ سُ نِربھءُ ہۄءِ ॥
جیَسا سیوےَ تیَسۄ ہۄءِ ॥4॥
ترجمہ
میں نے گرو سے مشورہ کیا ہے ، اور میں نے دیکھا ہے کہ اس کے سوا کوئی دوسرا دروازہ نہیں ہے۔
درد اور خوشی اس کی رضا اور اس کے حکم کی خوشنودی میں ہے۔نانک ، نانک ، کا کہنا ہے کہ ، رب کے لئے محبت کو گلے لگائیں۔گوری ، پہلا مہر:مایا کا دوچل دنیا کے لوگوں کے شعور میں رہتا ہے۔
وہ جنسی خواہش ، غصے اور مغروریت کے ذریعہ تباہ ہوچکے ہیں، (خدا کے سوا) اور کون ہے؟ (جو شخص اپنے آپ کو نام میں ڈوبتا ہے اور سچے گورکھ ہے وہ دیکھتا ہے) اس کے علاوہ کوئی اور طاقت نہیں ہے۔ایک بے عیب خدا سب میں پھیل رہا ہے۔ یہ دوہری ذہن والی بری عقل ہے ، جو دقلیت کا احساس دیتی ہے (یا خدا کے علاوہ کسی دوسری طاقت پر یقین رکھتی ہے)۔چنانچہ ، جو دِل کو نقصان پہنچاتا ہے وہ پیدائش اور موت کے ایک مستقل چکر میں پھنس جاتا ہے۔ گرو جی کہتے ہیں ، مجھے زمین یا آسمان میں ایک خدا کے سوا کوئی اور نہیں دکھتا۔ (وہ ہر طرف پھیر رہا ہے)۔میں اس دنیا کے تمام مردوں اور عورتوں میں ایک ہی روشنی (یا پاور) دیکھتا ہوں۔ یہاں تک کہ جب میں سورج اور چاند کی روشنی دیکھتا ہوں ،میں دیکھتا ہوں کہ میرا ہمیشہ سے جوانی والا پیارا ان کے درمیان رہتا ہے۔ اپنی رحمت کا مظاہرہ کرتے ہوئے ، (سچے گرو نے) میرے دماغ کو خدا کے ساتھ مطمئن کردیا۔
اور سچے گرو نے مجھے ایک خدا کے وجود کو سمجھایا ہےاکیلے۔گرو کے فضل و کرم سے ، میں نے ایک بے حد خدا کو سمجھا ہے۔گورو کے کلام کے ذریعہ ، دلیت کے احساس کو دبانے سے ، میں نے اس کا احساس کرلیا ہےایک خدا۔ (اب مجھے معلوم ہے کہ) ایک ہی خدا کا حکم تمام عالم میں غالب ہے
ایک خدا ہی سے ، پوری مخلوق وجود میں آئی ہے۔ دو راستے ہیں (اس دنیا میں زندگی گزارنے کا۔ ایک راستہ یہ ہے کہ دنیاوی حصوں میں الجھے رہو ، اور دوسرا راستہ ان سے جدا رہنا)۔ پھر بھی کسی کو یہ احساس ہونا چاہئے کہ ایک ہی (خدا) (دونوں طریقوں سے) مالک ہے۔گرو کے الفاظ کے ذریعہ ، خدا کے حکم کو پہچانیں (کہ وہ ایک ہے اور اس کا حکم ہر جگہ پھیلتا ہے) شکل اور رنگ کے تمام اختلافات ذہن میں ہیں۔نانک کہتے ہیں ، (اسی وجہ سے) ، میں اس ایک خدا کی تعریف کرتا ہوں (جو ان تمام شکلوں اور رنگوں میں رہتا ہے) پہلے گرو کے ذریعہ ، راگ گوری میں تحریر کردہ جو لوگ روحانی طرز زندگی گزارتے ہیں۔ وہی سچے ہیں۔باطل آزادی کے رازوں کے بارے میں کیا جان سکتا ہے؟ راہ میں غور کرنے والے یوگی ہیں۔وہ پانچ چوروں کو فتح کرتے ہیں ، اور سچے رب کو دل میں لگاتے ہیں۔وہ جو سچے رب کو گہری اندر داخل کرتے ہیں ،یوگا کی راہ کی قدر کو سمجھیں۔سورج اور چاند ان کے لئے یکساں ہیں ، جیسا کہ گھریلو اور بیابان ہیں۔ان کے یومیہ مشق کا کرم خداوند کی حمد کرنا ہے۔
وہ ایک ہی اور صرف ایک ہی جماعت کے بھیک مانگتے ہیں۔وہ روحانی حکمت اور مراقبہ ، اور زندگی کے صحیح طریقے سے بیدار اور بیدار رہتے ہیں۔وہ خدا کے خوف میں مبتلا رہتے ہیں۔ وہ اسے کبھی نہیں چھوڑتے۔ان کی قیمت کا اندازہ کون لگا سکتا ہے؟ وہ خداوند میں پیار سے جذب رہتے ہیں۔ خداوند ان کو اپنے ساتھ جوڑ دیتا ہے ، ان کے شکوک و شبہات کو دور کرتا ہے۔گرو کے فضل سے ، اعلی حیثیت حاصل کی جاتی ہے۔ گرو کی خدمت میں شبیہہ کی عکاسی ہوتی ہے۔انا کو دبائو ، خالص عمل پر عمل کرو۔ منانا ، مراقبہ ، خود نظم و ضبط اور پورانوں کو پڑھنا ،نانک کہتے ہیں ، لا محدود رب کے سپرد کرنے میں شامل ہیں۔ گوری ، پہلا مہر:معافی مانگنا ہی صحیح روزہ ، اچھ .ے اخلاق اور قناعت ہےبیماری مجھے تکلیف نہیں دیتی ، نہ ہی موت کا درد۔میں آزاد ہوا ، اور خدا میں مشغول ہوں ، جس کی کوئی شکل یا خصوصیت نہیں ہے۔یوگی کو کیا خوف ہے؟خداوند درختوں اور پودوں کے درمیان ہے ، گھر کے اندر اور باہر کے طور پرٹھیک ہے یوگیانی نڈر ، بے عیب رب کا دھیان کرتے ہیں۔رات دن وہ بیدار اور باشعور رہتے ہیں ، سچے رب سے پیار کرتے ہیں۔وہ یوگی میرے ذہن میں خوش ہیں۔ موت کا جال خدا کی آگ سے جل گیا ہے۔بڑھاپے ، موت اور غرور کو فتح کیا جاتا ہے۔
وہ پار کرتے ہیں ، اور اپنے آباؤ اجداد کو بھی بچاتے ہیں۔ جو سچے گرو کی خدمت کرتے ہیں وہ یوگی ہیں۔جو خدا کے خوف میں ڈوبے رہتے ہیں وہ نڈر ہوجاتے ہیں۔وہ اسی کی طرح ہو جاتے ہیں جس کی وہ خدمت کرتے ہیں۔
نر نِہکیول نِربھءُ ناءُ ॥
اناتھہ ناتھ کرے بلِ جاءُ ॥
پُنرپِ جنمُ ناہی گُݨ گاءُ ॥5॥
انّترِ باہرِ ایکۄ جاݨےَ ॥
گُر کےَ سبدے آپُ پچھاݨےَ ॥
ساچےَ سبدِ درِ نیِشاݨےَ ॥6॥
سبدِ مرےَ تِسُ نِج گھرِ واسا ॥
آوےَ ن جاوےَ چۄُکےَ آسا ॥
گُر کےَ سبدِ کملُ پرگاسا ॥2॥
جۄ دیِسےَ سۄ آس نِراسا ॥
کام کرۄدھ بِکھُ بھۄُکھ پِیاسا ॥
نانک بِرلے مِلہِ اُداسا ॥8॥7॥
گئُڑی محلا 1॥
ایَسۄ داسُ مِلےَ سُکھُ ہۄئی ॥
دُکھُ وِسرےَ پاوےَ سچُ سۄئی ॥1॥
درسنُ دیکھِ بھئی متِ پۄُری ॥
اٹھسٹھِ مجنُ چرنہ دھۄُری ॥1॥ رہاءُ ॥
نیت٘ر سنّتۄکھے ایک لِو تارا ॥
جِہوا سۄُچی ہرِ رس سارا ॥2॥
سچُ کرݨی ابھ انّترِ سیوا ॥
منُ ت٘رِپتاسِیا الکھ ابھیوا ॥3॥
جہ جہ دیکھءُ تہ تہ ساچا ॥
بِن بۄُجھے جھگرت جگُ کاچا ॥4॥
گُرُ سمجھاوےَ سۄجھی ہۄئی ॥
گُرمُکھِ وِرلا بُجھےَ کۄئی ॥5॥
کرِ کِرپا راکھہُ رکھوالے ۔ ॥
بِن بۄُجھے پسۄُ بھۓ بیتالے ॥6॥
گُرِ کہِیا اورُ نہی دۄُجا ॥
کِسُ کہُ دیکھِ کرءُ ان پۄُجا ॥7॥
سنّت ہیتِ پ٘ربھِ ت٘رِبھوݨ دھارے ॥
آتمُ چیِنےَ سُ تتُ بیِچارے ॥8॥
ساچُ رِدےَ سچُ پ٘ریم نِواس ॥
پ٘رݨوتِ نانک ہم تا کے داس ॥9॥8॥
گئُڑی محلا 1॥
ب٘رہمےَ گربُ کیِیا نہی جانِیا ॥
بید کی بِپتِ پڑی پچھُتانِیا ॥
جہ پ٘ربھ سِمرے تہی منُ مانِیا ॥1॥
ایَسا گربُ بُرا سنّسارےَ ॥
جِسُ گُرُ مِلےَ تِسُ گربُ نِوارےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
بلِ راجا مائِیا اہنّکاری ॥
جگن کرےَ بہُ بھار اپھاری ॥
بِنُ گُر پۄُچھے جاءِ پئِیاری ॥2॥
ہریِچنّدُ دانُ کرےَ جسُ لیوےَ ॥
بِنُ گُر انّتُ ن پاءِ ابھیوےَ ॥
آپِ بھُلاءِ آپے متِ دیوےَ ॥3॥
دُرمتِ ہرݨاکھسُ دُراچاری ॥
پ٘ربھُ نارائِݨُ گرب پ٘رہاری ॥
پ٘رہلاد اُدھارے کِرپا دھاری ॥4॥
بھۄُلۄ راوݨُ مُگدھُ اچیتِ ॥
لۄُٹی لنّکا سیِس سمیتِ ॥
گربِ گئِیا بِنُ ستِگُر ہیتِ ॥5॥
سہسباہُ مدھُ کیِٹ مہِکھاسا ॥
ہرݨاکھسُ لے نکھہُ بِدھاسا ॥
دیَت سنّگھارے بِنُ بھگتِ ابھِیاسا ॥6॥
جراسنّدھِ کالجمُن سنّگھارے ॥
رکتبیِجُ کالُنیمُ بِدارے ॥
دیَت سنّگھارِ سنّت نِستارے ॥7॥
آپے ستِگُرُ سبدُ بیِچارے ॥
ترجمہ
نام انسان کو پاکیزہ اور نڈر کرتا ہے۔خدا بے سہارا کو سب کا حامی بنا دیتا ہے اور میں اس کے لئے قربانی ہوں۔ایسے شخص کو دوبارہ جنم نہیں دیا جاتا۔ وہ خدا کی تسبیح گاتا ہے۔ باطن اور باطن میں وہ ایک ہی رب کو جانتا ہے۔گورو کے کلام کے ذریعہ ، وہ اپنے آپ کو محسوس کرتا ہے۔انہوں نے لارڈز کورٹ میں سچ باد کے بینر اور اشارہ اٹھائے۔ جو شخص شاد میں مرتا ہے وہ اپنے ہی گھر میں رہتا ہے۔ایسا شخص آکر دوبارہ جنم نہیں لیتا ، کیونکہ اس کی دنیاوی خواہشات ختم ہوجاتی ہیں۔کلامِ گورو کے ذریعہ ، اس کے دل میں کمل کھلتا ہے۔ جو بھی دیکھا جاتا ہے ، امید اور مایوسی سے کارفرما ہوتا ہے ،جنسی خواہش ، غصے ، بدعنوانی ، بھوک اور پیاس سےنانک ، وہ الگ الگ جماعتیں جو خداوند سے ملتی ہیں بہت کم ہوتے ہیں۔ پہلے گرو کے ذریعہ ، راگ گوری میں تحریر کردہ خدا کے ایسے سچے بندے سے ملنا ، شخص کو ہمیشہ سکون حاصل ہوتا ہے۔ایک سارا درد بھول جاتا ہے اور ابدی خدا کو حاصل کرتا ہے۔ (ایسے عقیدت مند) کی نظر دیکھ کر ، میری دانش کامل ہوگئ ہے۔مجھے محسوس ہوتا ہے کہ اڑسٹھتیس مقدسات زیارت کے مقامات پر نہانے کی خوبی اس کے پاؤں کی خاک میں ملتی ہے۔
میری آنکھیں ایک خدا کی مستقل محبت سے راضی ہیں۔میری زبان کو خداوند کے نہایت عمدہ جوہر سے پاک کیا گیا ہے۔ میرے عمل سچے ہیں ، اور میرے وجود کے اندر بھی ، میں اس کی خدمت کرتا ہوں۔میرا ذہن باطن ، پراسرار رب کی طرف سے مطمئن ہے۔ میں جہاں بھی نظر ڈالتا ہوں ، وہاں مجھے سچا رب ملتا ہے۔سمجھے بغیر دنیا باطل میں دلیل دیتی ہے۔جب گرو ہدایت دیتا ہے تو افہام و تفہیم حاصل ہوتا ہے۔کتنا نایاب ہے کہ گورمک جو سمجھے۔ اپنی رحمت کا مظاہرہ کر ، اور مجھے بچا ، اے نجات دہندہ!سمجھے بغیر ، لوگ درندے اور شیطان بن جاتے ہیں۔ گرو نے کہا ہے کہ کوئی دوسرا نہیں ہے۔تو مجھے بتاؤ ، مجھے کس کو دیکھنا چاہئے ، اور میں کس کی عبادت کروں؟ سنتوں کی خاطر ، خدا نے تینوں جہانوں کو قائم کیا۔جو اپنی روح کو سمجھتا ہے ، حقیقت کے جوہر پر غور کرتا ہے۔
جس کا دل سچے خدا سے سچی محبت میں رنگا ہوا ہے ،- نانک سے دعا ہے ، میں اس کا خادم ہوں۔
پہلے گرو کے ذریعہ ، راگ گوری میں تحریر کردہ برہما انا میں ملوث تھا اور اس کی لا محدود طاقت کو نہیں سمجھتا تھاخالق خداصرف اس وقت جب اسے ویدوں کے خاتمے کا سامنا کرنا پڑا تھا۔مراقبہ میں خدا کا ذکر کرتے ہوئے ، ذہن مجتمع ہوتا ہے۔ ایسی ہی دنیا کا خوفناک فخر ہے۔گرو اس سے ملنے والوں کا غرور ختم کرتا ہے۔ مایا اور مغروریت کے عالم میں بادشاہ کو بچائیں ،اپنی رسمی تقریبات کا انعقاد کیا ، لیکن وہ فخر سے فخر ہوگیا۔گرو کے مشورے کے بغیر ، انڈرورلڈ جانا پڑا۔ہری چند نے صدقہ کیا ، اور عوامی تعریف حاصل کی۔لیکن گرو کے بغیر ، اسے پراسرار رب کی حدود نہیں مل گئیں۔خداوند خود لوگوں کو گمراہ کرتا ہے ، اور وہ خود ہی عقل عطا کرتا ہے۔ شریر ذہن حناخش نے برے کاموں کا ارتکاب کیا۔خدا جو سب کا پروردگار ہے وہ فخر کو ختم کرنے والا ہے۔اس نے اپنی رحمت سے نوازا ، اور پرہلاد کو بچایا۔ راون کو بے وقوف ، بے وقوف اور بے وقوف بنایا گیا۔سری لنکا کو لوٹا گیا ، اور وہ اپنا سر کھو بیٹھا۔وہ انا میں ملوث تھا ، اور سچے گرو کی محبت کا فقدان تھا۔خداوند نے ہزاروں لیس ارجن کو اور راکشسوں کو مدھو کیتاب اور ہلاک کیامہ کھاسا۔اس نے ہرناکش کو پکڑ لیا اور اسے اپنے ناخنوں سے پھاڑ دیا۔شیطانوں کو ہلاک کیا گیا۔ انہوں نے عقیدت مندانہ عبادت پر عمل نہیں کیا۔
راکشسوں جارا سنڈھ اور کال جامون کو تباہ کردیا گیا۔راقیت بیج اور کال نعیم فنا ہوگئے۔اس طرح راکشسوں کو ہلاک کرکے ، خدا نے اپنے سنتوں کو بچایا۔ وہ خود بھی بطور سچے گورو شُبہ پر غور کرتا ہے۔
دۄُجےَ بھاءِ دیَت سنّگھارے ॥
گُرمُکھِ ساچِ بھگتِ نِستارے ॥8॥
بۄُڈا دُرجۄدھنُ پتِ کھۄئی ॥
رامُ ن جانِیا کرتا سۄئی ॥
جن کءُ دۄُکھِ پچےَ دُکھُ ہۄئی ॥9॥
جنمیجےَ گُر سبدُ ن جانِیا ॥
کِءُ سُکھُ پاوےَ بھرمِ بھُلانِیا ॥
اِکُ تِلُ بھۄُلےَ بہُرِ پچھُتانِیا ॥ 10 ॥
کنّسُ کیسُ چانْڈۄُرُ ن کۄئی ॥
رامُ ن چیِنِیا اپنی پتِ کھۄئی ॥
بِنُ جگدیِس ن راکھےَ کۄئی ॥ 11 ॥
بِنُ گُر گربُ ن میٹِیا جاءِ ॥
گُرمتِ دھرمُ دھیِرجُ ہرِ ناءِ ॥
نانک نامُ مِلےَ گُݨ گاءِ ॥ 12 ॥9॥
گئُڑی محلا 1॥
چۄیا چنّدنُ انّکِ چڑاوءُ ॥
پاٹ پٹنّبر پہِرِ ہڈھاوءُ ॥
بِنُ ہرِ نام کہا سُکھُ پاوءُ ۔ ॥1॥
کِیا پہِرءُ کِیا اۄڈھِ دِکھاوءُ ۔ ॥
بِنُ جگدیِس کہا سُکھُ پاوءُ ۔ ॥1॥ رہاءُ ॥
کانی کُنّڈل گلِ مۄتیِئن کی مالا ॥
لال نِہالی پھۄُل گُلالا ॥
بِنُ جگدیِس کہا سُکھُ بھالا ۔ ॥2॥
نیَن سلۄنی سُنّدر ناری ॥
کھۄڑ سیِگار کرےَ اتِ پِیاری ॥
بِنُ جگدیِس بھجے نِت خُیاری ॥3॥
در گھر محلا سیج سُکھالی ॥
اہِنِسِ پھۄُل بِچھاوےَ مالی ॥
بِنُ ہرِ نام سُ دیہ دُکھالی ॥4॥
ہیَور گیَور نیجے واجے ॥
لشکر نیب خواسی پاجے ॥
بِنُ جگدیِس جھۄُٹھے دِواجے ॥5॥
سِدھُ کہاوءُ رِدھِ سِدھِ بُلاوءُ ॥
تاج کُلہ سِرِ چھت٘رُ بناوءُ ॥
بِنُ جگدیِس کہا سچُ پاوءُ ۔ ॥6॥
کھانُ ملۄُکُ کہاوءُ راجا ॥
ابے تبے کۄُڑے ہےَ پاجا ॥
بِنُ گُر سبد ن سورسِ کاجا ॥7॥
ہئُمےَ ممتا گُر سبدِ وِساری ॥
گُرمتِ جانِیا رِدےَ مُراری ॥
پ٘رݨوتِ نانک سرݨِ تُماری ॥8॥ 10 ॥
گئُڑی محلا 1॥
سیوا ایک ن جانسِ اورے ॥
پرپنّچ بِیادھِ تِیاگےَ کورے ॥
بھاءِ مِلےَ سچُ ساچےَ سچُ رے ॥1॥
ایَسا رام بھگتُ جنُ ہۄئی ॥
ہرِ گُݨ گاءِ مِلےَ ملُ دھۄئی ॥1॥ رہاءُ ॥
اۄُنْدھۄ کولُ سگل سنّسارےَ ॥
دُرمتِ اگنِ جگت پرجارےَ ॥
سۄ اُبرےَ گُر سبدُ بیِچارےَ ॥2॥
بھ٘رِنّگ پتنّگُ کُنّچرُ ارُ میِنا ॥
مِرگُ مرےَ سہِ اپُنا کیِنا ॥
ت٘رِسنا راچِ تتُ نہی بیِنا ॥3॥
کامُ چِتےَ کامݨِ ہِتکاری ॥
ک٘رۄدھُ بِناسےَ سگل وِکاری ॥
پتِ متِ کھۄوہِ نامُ وِساری ॥4॥
ترجمہ
دشمنی کی محبت کی وجہ سے ، خدا نے راکشسوں کو ہلاک کیا۔ان کی حقیقی عقیدت سے ، گورمک محفوظ ہوگئے ہیں۔ ڈوبتے ہوئے ، درودھن اپنی عزت گنوا بیٹھا۔وہ خالق رب کو نہیں جانتا تھا۔جو شخص رب کے عاجز بندے کو تکلیف پہنچاتا ہے ، وہ خود تکلیف اٹھائے گا اور سڑ جائے گا۔جانامیجا کو گرو کے الفاظ کا کلام نہیں معلوم تھا۔شکوک و شبہات سے دوچار ، وہ کیسے سکون پا سکتا ہے؟
غلطی کرنا ، یہاں تک کہ ایک لمحہ کے لئے بھی ، آپ کو بعد میں پچھتاوا اور توبہ کرنا پڑے گا۔کانسا کنگ اور اس کے جنگجو کیز اور چندر کے پاس کوئی مساوی نہیں تھا۔لیکن انہوں نے خداوند کو یاد نہیں کیا ، اور وہ اپنی عزت کھو بیٹھے۔رب کائنات کے بغیر ، کوئی بھی بچایا نہیں جاسکتا۔ گرو کے بغیر غرور کو مٹایا نہیں جاسکتا۔گرو کی تعلیمات کے بعد ، ایک شخصی عقیدے ، کمال اور خداوند کا نام پاتا ہے۔
اے نانک ، خدا کی تسبیح گاتے ہوئے ، اس کا نام مل گیا۔گوری ، پہلا مہر:میں اپنے اعضاء کو صندل کے تیل سے مسح کرسکتا ہوں۔میں تیار ہوکر ریشم اور ساٹن کپڑے پہن سکتا ہوں۔لیکن خداوند کے نام کے بغیر ، مجھے کہاں سکون ملے گا؟ تو میں کیا پہنوں؟ مجھے خود کو کس کپڑوں میں ڈسپلے کرنا چاہئے؟
رب کائنات کے بغیر ، میں کیسے سکون پا سکتا ہوں؟ میں کان کی انگوٹھی ، اور اپنے گلے میں موتی کا ہار پہن سکتا ہوں۔میرا بستر سرخ کمبل ، پھول اور سرخ پاؤڈر سے مزین ہوسکتا ہے۔لیکن رب کائنات کے بغیر ، میں امن کی تلاش کہاں کرسکتا ہوں؟ میری دلکش آنکھوں والی خوبصورت عورت ہو سکتی ہے۔وہ سولہ زینتوں سے اپنے آپ کو سج سکتی ہے اور اپنے آپ کو خوبصورت دکھاتی ہے۔لیکن خدائے کائنات کا دھیان کیے بغیر صرف مسلسل تکلیف ہوتی ہے۔اس کے چہرہ اور گھر میں ، اس کے محل میں ، اپنے نرم اور آرام دہ بستر پر ،دن رات ، پھولوں کی لڑکیاں پھولوں کی پنکھڑیوں کو بکھرتی ہیں۔لیکن خداوند کے نام کے بغیر ، جسم دکھی ہے۔ گھوڑے ، ہاتھی ، لینس ، مارچنگ بینڈ ،
فوجیں ، معیاری سامان اٹھانے والے ، شاہی خدمت گزار اور عیاں دکھائ- رب کائنات کے بغیر ، یہ کام سب بیکار ہیں۔ اسے سدھا ، روحانی کمال کا آدمی کہا جاسکتا ہے ، اور وہ دولت اور مافوق الفطرت طاقتوں کو طلب کرسکتا ہے۔وہ اپنے سر پر تاج رکھ سکتا ہے ، اور شاہی چھتری لے سکتا ہے۔لیکن خداوند عالم کے بغیر سچائی کہاں سے مل سکتی ہے؟ اسے شہنشاہ ، مالک اور بادشاہ کہا جاسکتا ہے۔وہ احکامات دے سکتا ہے – “اب یہ کرو ، پھر یہ کرو” – لیکن یہ غلط ڈسپلے ہے۔گورو کے کلام کے بغیر ، اس کے کام انجام نہیں پائے جاتے ہیں۔گروت کے کلام کے ذریعہ ہندیت اور ملکیت کو ختم کردیا جاتا ہے۔میرے دل میں گرو کی تعلیمات کے ساتھ ، میں نے خداوند کو جان لیا ہے۔نانک سے دعا ہے ، میں آپ کا حرمت ڈھونڈتا ہوں۔گوری ، پہلا مہر:جو ایک ہی رب کی خدمت کرتے ہیں ، وہ کسی دوسرے کو نہیں جانتے۔وہ تلخ دنیاوی تنازعات کو چھوڑ دیتے ہیں۔محبت اور سچائی کے ذریعہ ، وہ سچے کی سچائی سے ملتے ہیں۔ ایسے ہی رب کے عاجز عقیدت مند ہیں۔وہ خداوند کی حمد گاتے ہیں اور ان کی آلودگی دھل جاتی ہے۔پوری کائنات کا دل کمل الٹا ہے۔ (مرجھا ہوا حالت میں)شیطانیت کی آگ دنیا کو جلا رہی ہے۔وہ اکیلے ہی نجات پا چکے ہیں ، جو گورو کے کلام پر غور کرتے ہیں۔ بلبلا مکھی ، کیڑا ، ہاتھی ، مچھلی ،اور ہرن – سب اپنے اعمال کی وجہ سے مبتلا ہیں ، اور مر جاتے ہیں۔خواہش سے پھنسے ہوئے ، وہ حقیقت نہیں دیکھ سکتے ہیں۔خواتین کا عاشق جنسی تعلقات کا شکار ہے۔سارے شریر اپنے قہر سے برباد ہوگئے۔عزت اور نیک نیتی کھو جاتی ہے ، جب کوئی نام ، رب کا نام بھول جاتا ہے۔
پر گھرِ چیِتُ منمُکھِ ڈۄلاءِ ॥
گلِ جیوری دھنّدھےَ لپٹاءِ ॥
گُرمُکھِ چھۄُٹسِ ہرِ گُݨ گاءِ ॥5॥
جِءُ تنُ بِدھوا پر کءُ دیئی ॥
کامِ دامِ چِتُ پر وسِ سیئی ॥
بِنُ پِر ت٘رِپتِ ن کبہۄُنّ ہۄئی ॥6॥
پڑِ پڑِ پۄتھی سِنّم٘رِتِ پاٹھا ॥
بید پُراݨ پڑےَ سُݨِ تھاٹا ॥
بِنُ رس راتے منُ بہُ ناٹا ॥7॥
جِءُ چات٘رِک جل پ٘ریم پِیاسا ॥
جِءُ میِنا جل ماہِ اُلاسا ॥
نانک ہرِ رسُ پی ت٘رِپتاسا ॥8॥ 11 ॥
گئُڑی محلا 1॥
ہٹھُ کرِ مرےَ ن لیکھےَ پاوےَ ॥
ویس کرےَ بہُ بھسم لگاوےَ ॥
نامُ بِسارِ بہُرِ پچھُتاوےَ ॥1॥
تۄُنّ منِ ہرِ جیءُ تۄُنّ منِ سۄُکھ ॥
نامُ بِسارِ سہہِ جم دۄُکھ ॥1॥ رہاءُ ॥
چۄیا چنّدن اگر کپۄُرِ ॥
مائِیا مگنُ پرم پدُ دۄُرِ ॥
نامِ بِسارِۓَ سبھُ کۄُڑۄ کۄُرِ ॥2॥
نیجے واجے تختِ سلامُ ॥
ادھکی ت٘رِسنا وِیاپےَ کامُ ॥
بِنُ ہرِ جاچے بھگتِ ن نامُ ॥3॥
وادِ اہنّکارِ ناہی پ٘ربھ میلا ॥
منُ دے پاوہِ نامُ سُہیلا ॥
دۄُجےَ بھاءِ اگِیانُ دُہیلا ॥4॥
بِنُ دم کے سئُدا نہی ہاٹ ॥
بِنُ بۄہِتھ ساگر نہی واٹ ॥
بِنُ گُر سیوے گھاٹے گھاٹِ ॥5॥
تِس کءُ واہُ واہُ جِ واٹ دِکھاوےَ ॥
تِس کءُ واہُ واہُ جِ سبدُ سُݨاوےَ ॥
تِس کءُ واہُ واہُ جِ میلِ مِلاوےَ ॥6॥
واہُ واہُ تِس کءُ
جِس کا اِہُ جیءُ ॥
گُر سبدی متھِ انّم٘رِتُ پیءُ ॥
نام وڈائی تُدھُ بھاݨےَ دیءُ ॥7॥
نام بِنا کِءُ جیِوا ماءِ ۔ ॥
اندِنُ جپتُ رہءُ تیری سرݨاءِ ॥
نانک نامِ رتے پتِ پاءِ ॥8॥ 12 ॥
گئُڑی محلا 1॥
ہئُمےَ کرت بھیکھی نہی جانِیا ॥
گُرمُکھِ بھگتِ وِرلے منُ مانِیا ॥1॥
ہءُ ہءُ کرت نہی سچُ پائیِۓَ ॥
ہئُمےَ جاءِ پرم پدُ پائیِۓَ ॥1॥ رہاءُ ॥
ہئُمےَ کرِ راجے بہُ دھاوہِ ॥
ہئُمےَ کھپہِ جنمِ مرِ آوہِ ॥2॥
ہئُمےَ نِورےَ گُر سبدُ ویِچارےَ ॥
چنّچل متِ تِیاگےَ پنّچ سنّگھارےَ ॥3॥
انّترِ ساچُ سہج گھرِ آوہِ ॥
راجنُ جاݨِ پرم گتِ پاوہِ ॥4॥
سچُ کرݨی گُرُ بھرمُ چُکاوےَ ॥
نِربھءُ کےَ گھرِ تاڑی لاوےَ ॥5॥
ہءُ ہءُ کرِ مرݨا کِیا پاوےَ ۔ ॥
پۄُرا گُرُ بھیٹے سۄ جھگرُ چُکاوےَ ॥6॥
جیتی ہےَ تیتی کِہُ ناہی ॥
گُرمُکھِ گِیان بھیٹِ گُݨ گاہی ॥2॥
ترجمہ
خود غرور شخص کا ذہن دوسری عورت کی طرف راغب ہوتا ہے۔ایسا کرکے ، وہ دراصل اپنے آپ کو دُکھوں کے جال میں پھنسا رہا ہے۔لیکن گرو کے پیروکار خدا کی حمد گاتے ہوئے ان تمام الجھنوں سے بچ جاتے ہیں۔ بالکل اسی طرح جیسے ایک بیوہ عورت (ایک ناخوشگوار) عورت اپنا جسم اجنبی کے حوالے کرتی ہے ،یہاں تک کہ وہ اس کے دماغ کو دوسروں کے ذریعہ ہوس یا پیسوں کی وجہ سے بھی کنٹرول کرنے دیتی ہے۔لیکن جائز شوہر کے بغیر وہ کبھی بھی مطمئن نہیں ہوتا ہے۔ (اسی طرح ، شوہر خدا کو ترک کرنا روح کی دلہن برائیوں میں ملوث ہے اور کبھی روحانی سکون حاصل نہیں کرتا ہے)۔ایک پنڈت یا عالم دین مقدس کتابیں پڑھتا ہے ، سمریات ، وید ، پورن اور دیگر تالیفات کی تلاوت کرتا ہے ،لیکن نام کے امرت چکھنے کے بغیر ، اس کا دماغ بے حد گھوم جاتا ہے۔ جس طرح بارش برد بارش کے ساتھ پیار اور پیاس رکھتا ہے۔اور جس طرح مچھلی پانی میں خوشی محسوس کرتی ہے ،اسی طرح ، اے ’نانک ، خدا کا بھکت خدا کے نام کا امرت کھا کر تسکین محسوس کرتا ہے۔راگ گوری ، پہلا گرو:یہاں تک کہ اگر کوئی شخص اذیت ناک یوگا مشقوں اور سادگیوں کے دوران مر گیا (تکلیف میں مبتلا) ، تو خدا کی عدالت میں اس کا کوئی فائدہ نہیں ہے۔یہاں تک کہ اگر کوئی مذہبی لباس پہن سکے اور اس کے جسم کو راکھ سے مہکائے۔لیکن نام کو چھوڑتے ہوئے ، اسے آخر میں افسوس ہے۔ اے میرے دوست ، خدا کو اپنے ذہن میں رکھو اور خوشی سے لطف اٹھائے۔
نام کو ترک کرنے سے ، آپ موت کے خوف اور تکلیف کو برداشت کریں گے۔ اگر کوئی شخص دنیاوی لذتوں میں مگن ہے جیسے خوشبو جیسے سینڈل ، مسببر کی لکڑی ، کپور اورمایا کی جستجو؛ پھر اعلی روحانی حالت اس سے بہت دور ہے۔اگر کوئی نام بھول جاتا ہے ، تو باقی سب جھوٹا اور بیکار ہے۔
لینز ، مارچنگ بینڈ ، تخت اور دوسروں کی سلامی ،صرف دنیاوی دولت اور ہوس کی خواہش کو بڑھاؤ۔
خدا کی تلاش کیے بغیر نہ تو کوئی عقیدت مند عبادت اور نہ ہی نام حاصل ہوسکتا ہے۔ خدا کے ساتھ اتحاد علمی دلائل اور غرور سے حاصل نہیں ہوتا ہے۔ذہن کو خدا کے سپرد کرنے سے ہی انسان کو خوش کن نام حاصل ہوتا ہے۔عشقیہ کی محبت صرف جہالت اور بدحالی کی طرف جاتا ہے۔ بالکل اسی طرح جیسے کوئی بھی بغیر پیسے کے دکان سے کچھ نہیں خرید سکتا ،اور جس طرح کوئی جہاز کے بغیر سمندر پار نہیں کرسکتا ،اسی طرح ، گرو کی تعلیمات پر عمل کیے بغیر روحانی دولت کا مکمل نقصان ہوتا ہے۔اے میرے دوست ، اس کی تعریف کرتے ہیں جو گرو کے راستباز زندگی کو ظاہر کرتا ہے۔
بار بار اس کی تعظیم کرو جو خدا کی حمد کا الہی کلام تلاوت کرتا ہے۔ہاں ، مبارک ہے وہ گرو جو ہمیں خدا کے ساتھ جوڑ دیتا ہے۔ اے میرے دوست ، خدا کی بے حد تعریف کریں جس نے ہمیں اس زندگی میں نوازاگورو کے کلام کے ذریعہ بار بار خدا کی خوبیوں پر غور کریں اور نام کے حیرت انگیز امیت میں حصہ لیں۔اے خدا ، آپ کے حکم سے نام کی شان عطا ہوئی ہے۔ اے میری ماں ، میں نام پر دھیان دئے بغیر روحانی طور پر کیسے زندہ رہ سکتا ہوں؟اے اللہ ، مجھے برکت دے ، تاکہ میں ہمیشہ قائم رہوں اپنے نام پر غور کرتے ہوئے اپنی پناہ میں۔اے نانک ، نام کی محبت میں رنگین رہ کر یہاں اور اس کے بعد بھی عزت حاصل ہوتی ہے۔ راگ گوری ، پہلا گرو:کسی نے بھی کبھی تکبر اور مذہبی لباس پہن کر خدا کو محسوس نہیں کیا۔شاذ و نادر ہی گرو کے پیروکار ہیں ، جن کا ذہن عقیدت مندانہ عبادتوں سے سیر ہوتا ہے۔ ابدی خدا خود غرضی میں ملوث ہونے کا احساس نہیں ہوتا ہے۔عظمت روحانی حالت تب ہی حاصل ہوتی ہے جب انا رخصت ہوتا ہے۔ اپنی انا کی تسکین کے لئے ، بادشاہ اور حکمران دوسری قوموں پر حملہ کرتے ہیں۔اپنی انا کی وجہ سے وہ پیدائش اور موت کے چکروں میں مبتلا رہتے ہیں۔جو گرو کے کلام پر غور کرتا ہے وہ اپنی انا کو دور کرتا ہے۔وہ پارسی کی عقل کو بہا دیتا ہے اور پانچ بری جذبات کو مٹا دیتا ہے۔ وہ ، جن کے اندر دائمی خدا آباد ہوتا ہے ، وہ بدیہی سکون سے لطف اندوز ہوتے ہیں۔خودمختار خدا کا احساس کرکے وہ اعلیٰ روحانی حالت کو حاصل کرتے ہیں۔ ایک جس کے شکوک گرو کو دور کرتے ہیں ، نام پر دھیان اس کا روز کا عمل بن جاتا ہے ،
اور وہ ہمیشہ نڈر خدا کی طرف مائل رہتا ہے۔ روحانی بگاڑ کے علاوہ ، انا میں مبتلا ہوجانے سے کیا حاصل ہوتا ہے؟جو کامل گرو کی تعلیمات پر عمل کرتا ہے وہ انا کی تمام لڑائیوں کا خاتمہ کرتا ہے۔ کسی کی انا کو ترغیب دینے کے لئے ادھر ادھر گھومنے سے کوئی روحانی فائدہ حاصل نہیں ہوتا ہے۔گرو کے پیروکار اس کی طرف سے روحانی حکمت حاصل کرکے خدا کی حمد گاتے ہیں۔
ہئُمےَ بنّدھن بنّدھِ بھواوےَ ॥
نانک رام بھگتِ سُکھُ پاوےَ ॥8॥ 13 ॥
گئُڑی محلا 1॥
پ٘رتھمے ب٘رہما کالےَ گھرِ آئِیا ॥
ب٘رہم کملُ پئِیالِ ن پائِیا ॥
آگِیا نہی لیِنی بھرمِ بھُلائِیا ॥1॥
جۄ اُپجےَ سۄ کالِ سنّگھارِیا ॥
ہم ہرِ راکھے
گُر سبدُ بیِچارِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
مائِیا مۄہے دیوی سبھِ دیوا ॥
کالُ ن چھۄڈےَ بِنُ گُر کی سیوا ॥
اۄہُ ابِناسی الکھ ابھیوا ॥2॥
سُلطان خان بادِشاہ نہی رہنا ॥
نامہُ بھۄُلےَ جم کا دُکھُ سہنا ॥
مےَ دھر نامُ جِءُ راکھہُ رہنا ॥3॥
چئُدھری راجے نہی کِسےَ مُقامُ ॥
ساہ مرہِ سنّچہِ مائِیا دام ॥
مےَ دھنُ دیِجےَ ہرِ انّم٘رِت نامُ ॥4॥
رېتِ مہر مُقدم سِکدارےَ ॥
نِہچلُ کۄءِ ن دِسےَ سنّسارےَ ॥
اپھرِءُ کالُ کۄُڑُ سِرِ مارےَ ॥5॥
نِہچلُ ایکُ سچا سچ سۄئی ॥
جِنِ کرِ ساجی تِنہِ سبھ گۄئی ॥
اۄہُ گُرمُکھِ جاپےَ تاں پتِ ہۄئی ॥3॥
قاضی سیکھ بھیکھ فقیِرا ॥
وڈے کہاوہِ ہئُمےَ تنِ پیِرا ॥
کالُ ن چھۄڈےَ بِنُ ستِگُر کی دھیِرا ॥1॥
کالُ جالُ جِہوا ارُ نیَݨی ॥
کانی کالُ سُݨےَ بِکھُ بیَݨی ॥
بِنُ سبدےَ مۄُٹھے دِنُ ریَݨی ॥8॥
ہِردےَ ساچُ وسےَ ہرِ ناءِ ॥
کالُ ن جۄہِ سکےَ گُݨ گاءِ ॥
نانک گُرمُکھِ سبدِ سماءِ ॥9॥ 14 ॥
گئُڑی محلا 1॥
بۄلہِ ساچُ مِتھِیا نہی رائی ॥
چالہِ گُرمُکھِ حُکمِ رضائی ॥
رہہِ اتیِت سچے سرݨائی ॥1॥
سچ گھرِ بیَسےَ کالُ ن جۄہےَ ॥
منمُکھ کءُ آوت جاوت دُکھُ مۄہےَ ॥1॥ رہاءُ ॥
اپِءُ پیِئءُ اکتھُ کتھِ رہیِۓَ ॥
نِج گھرِ بیَسِ سہج گھرُ لہیِۓَ ॥
ہرِ رسِ ماتے اِہُ سُکھُ کہیِۓَ ॥2॥
گُرمتِ چال نِہچل نہی ڈۄلےَ ॥
گُرمتِ ساچِ سہجِ ہرِ بۄلےَ ॥
پیِوےَ انّم٘رِتُ تتُ وِرۄلےَ ॥3॥
ستِگُرُ دیکھِیا دیِکھِیا لیِنی ॥
منُ تنُ ارپِئۄ انّتر گتِ کیِنی ॥
گتِ مِتِ پائی آتمُ چیِنی ॥4॥
بھۄجنُ نامُ نِرنّجن سارُ ॥
پرم ہنّسُ سچُ جۄتِ اپار ॥
جہ دیکھءُ تہ ایکنّکارُ ॥5॥
رہےَ نِرالمُ ایکا سچُ کرݨی ॥
پرم پدُ پائِیا سیوا گُر چرݨی ॥
من تے منُ مانِیا
چۄُکی اہنّ بھ٘رمݨی ॥6॥
اِن بِدھِ کئُݨُ کئُݨُ نہی تارِیا ۔ ॥
ہرِ جسِ سنّت بھگت نِستارِیا ॥
ترجمہ
انڈوزم انسان کو غلامی میں باندھ دیتا ہے ، اور گمشدہ گھومنے پھرنے کا سبب بنتا ہے۔نانک ، رب رب کی عبادت سے امن حاصل ہوتا ہے۔ گوری ، پہلا مہر:پہلے برہما موت کے گھر میں داخل ہوا۔
برہما کمل میں داخل ہوا ، اور اس نے قریب کے علاقوں کی تلاش کی ، لیکن وہ نہیں ملااس کا خاتمہ
اس نے لارڈز کے آرڈر کو قبول نہیں کیا – اسے شک کی وجہ سے گمراہ کیا گیا۔جو بھی پیدا کیا گیا ہے ، وہ موت سے تباہ ہو جائے گا۔لیکن میں خداوند کی طرف سے محفوظ ہوں۔ میں گرو کے الفاظ پر غور کرتا ہوں۔تمام دیویوں اور دیویوں کو مایا نے اپنی طرف مائل کیا۔گورو کی خدمت کیے بغیر موت کو نہیں ٹال سکتا۔وہ رب ناقابل معافی ، پوشیدہ اور ناقابل معافی ہے۔سلطان ، شہنشاہ اور بادشاہ باقی نہیں رہیں گے۔نام کو بھول کر ، وہ موت کی تکلیف برداشت کریں گے۔میرا واحد سہارا نام ، رب کا نام ہے ، جیسا کہ اس نے مجھے برقرار رکھا ، میں زندہ ہوں۔قائدین اور بادشاہ باقی نہیں رہیں گے۔بینکر اپنی دولت اور دولت جمع کرنے کے بعد مرجائیں گے۔اے رب ، مجھے اپنے نام کی دولت کی دولت عطا فرما۔ عوام ، حکمران ، قائدین اور سربراہان- ان میں سے کوئی بھی دنیا میں نہیں رہ سکے گا۔موت ناگزیر ہے۔ یہ باطل کے سروں پر وار کرتا ہے۔ صرف ایک ہی رب ، سچا کا سچا ، مستقل ہے۔جس نے سب کچھ پیدا کیا اور اس کی طرز بنائی ، اسے ختم کردے۔جو گورکھ بن جاتا ہے اور رب کا دھیان کرتا ہے وہی عزت پا جاتا ہے۔ مذہبی لباس میں قاضی ، شیخ اور جعلی خود کو عظیم کہتے ہیں۔ لیکن ان کی غرور سے ان کے جسم درد میں مبتلا ہیں۔سچے گرو کی مدد کے بغیر ، موت ان کو نہیں بخشا گی۔ موت کی جال ان کی زبان اور آنکھوں پر لٹک رہی ہے۔جب وہ برائی کی باتیں سنتے ہیں تو ان کے کانوں پر موت آجاتی ہے۔شبد. کے بغیر دن رات لوٹ مار کرتے ہیں۔ موت ان لوگوں کو چھو نہیں سکتی جن کے دل خداوند کے سچے نام سے لبریز ہیں ، اور جو خدا کی تسبیح گاتے ہیں۔نانک ، گورمک کلام الشباب میں مشغول ہے۔ گوری ، پہلا مہر:وہ سچ بولتے ہیں – جھوٹ کا محور نہیں۔گورکھ رب کے حکم کی پیروی کرتے ہیں۔وہ سچی پروردگار کی حرمت میں غیر متزلزل ہیں۔ وہ اپنے حقیقی گھر میں رہتے ہیں ، اور موت ان کو چھوتی نہیں ہے۔نفسانی خواہ مخواہ جذباتی لگاؤ کے درد میں آکر جاتے ہیں۔
لہذا ، اس امرت کو گہرائی سے پیئے ، اور بے ساختہ تقریر کریں۔اپنے ہی اندر رہنے والے گھر میں رہتے ہوئے ، آپ کو بدیہی سکون کا گھر مل جائے گا۔ایک جو رب کی عظمت جوہر کے ساتھ آمادہ ہے ، کہا جاتا ہے کہ وہ اس سکون کا تجربہ کرتا ہے۔ گرو کی تعلیمات کے بعد ، ایک بالکل مستحکم ہوجاتا ہے ، اور کبھی ڈگمگاتا نہیں ہے۔گرو کی تعلیمات پر عمل کرتے ہوئے ، ایک شخص بدیہی طور پر سچے رب کے نام کا نعرہ لگاتا ہے۔اس حیرت انگیز امرت میں شراب پینا ، اور اسے منوانا ، ضروری حقیقت کا پتہ چلتا ہے۔ سچے گرو کو دیکھتے ہوئے ، مجھے اس کی تعلیمات ملی ہیں۔میں نے اپنے وجود میں گہرائی سے تلاش کرنے کے بعد ، اپنے دماغ اور جسم کی پیش کش کی ہے۔مجھے اپنی جان کو سمجھنے کی اہمیت کا احساس ہوا ہے۔ نام ، مطلق رب کا نام ، بہترین اور عمدہ کھانا ہے۔خالص ہنس روحیں لاتعداد رب کی حقیقی روشنی دیکھتی ہیں۔میں جہاں بھی نظر ڈالتا ہوں ، میں ایک ہی واحد رب کو دیکھتا ہوں۔جو پاک اور بے عیب رہتا ہے اور صرف سچے کاموں پر عمل کرتا ہے ،گرو کے پاؤں پر خدمت کرتے ہوئے ، اعلی درجہ حاصل کرتا ہے۔دماغ ذہن کے ساتھ ملاپ ہوجاتا ہے ، اور انا کے گھومنے والے راستے ختم ہوجاتے ہیں۔ اس طرح سے ، کون – کون نہیں بچایا گیا؟خداوند کی حمد نے اس کے اولیاؤں اور عقیدت مندوں کو بچایا ہے۔
پ٘ربھ پاۓ ہم اورُ ن بھارِیا ॥7॥
ساچ محلِ گُرِ الکھُ لکھائِیا ॥
نِہچل محلُ نہی چھائِیا مائِیا ॥
ساچِ سنّتۄکھے بھرمُ چُکائِیا ॥8॥
جِن کےَ منِ وسِیا سچُ سۄئی ॥
تِن کی سنّگتِ گُرمُکھِ ہۄئی ॥
نانک ساچِ نامِ ملُ کھۄئی ॥9॥ 15 ॥
گئُڑی محلا 1॥
رامِ نامِ چِتُ راپےَ جا کا ॥
اُپجنّپِ درسنُ کیِجےَ تا کا ॥1॥
رام ن جپہُ ابھاگُ تُمارا ॥
جُگِ جُگِ داتا پ٘ربھُ رامُ ہمارا ॥1॥ رہاءُ ॥
گُرمتِ رامُ جپےَ جنُ پۄُرا ॥
تِتُ گھٹ انہت باجے تۄُرا ॥2॥
جۄ جن رام بھگتِ ہرِ پِیارِ ॥
سے پ٘ربھِ راکھے کِرپا دھارِ ॥3॥
جِن کےَ ہِردےَ ہرِ ہرِ سۄئی ॥
تِن کا درسُ پرسِ سُکھُ ہۄئی ॥4॥
سرب جیِیا مہِ ایکۄ روےَ ॥
منمُکھِ اہنّکاری پھِرِ جۄُنی بھوےَ ॥5॥
سۄ بۄُجھےَ جۄ ستِگُرُ پاۓ ॥
ہئُمےَ مارے گُر سبدے پاۓ ॥6॥
اردھ اُردھ کی سنّدھِ کِءُ جانےَ ۔ ॥
گُرمُکھِ سنّدھِ مِلےَ منُ مانےَ ॥7॥
ہم پاپی نِرگُݨ کءُ گُݨُ کریِۓَ ॥
پ٘ربھ ہۄءِ دئِیالُ نانک جن تریِۓَ ॥8॥ 16 ॥
سۄلہ اسٹپدیِیا گُیاریری گئُڑی کیِیا ॥
گئُڑی بیَراگݨِ محلا 1
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
جِءُ گائی کءُ گۄئِلی
راکھہِ کرِ سارا ॥
اہِنِسِ پالہِ راکھِ لیہِ
آتم سُکھُ دھارا ॥1॥
اِت اُت راکھہُ دیِن دئِیالا ۔ ॥
تءُ سرݨاگتِ ندرِ نِہالا ॥1॥ رہاءُ ॥
جہ دیکھءُ تہ روِ رہے
رکھُ راکھنہارا ॥
تۄُنّ داتا بھُگتا تۄُنّہےَ
تۄُنّ پ٘راݨ ادھارا ॥2॥
کِرتُ پئِیا ادھ اۄُردھی
بِنُ گِیان بیِچارا ॥
بِنُ اُپما جگدیِس کی
بِنسےَ ن انّدھِیارا ॥3॥
جگُ بِنست ہم دیکھِیا
لۄبھے اہنّکارا ॥
گُر سیوا پ٘ربھُ پائِیا
سچُ مُکتِ دُیارا ॥4॥
نِج گھرِ محلُ اپار کۄ
اپرنّپرُ سۄئی ॥
بِنُ سبدےَ تھِرُ کۄ نہی
بۄُجھےَ سُکھُ ہۄئی ॥5॥
کِیا لےَ آئِیا لے جاءِ کِیا
پھاسہِ جم جالا ॥
ڈۄلُ بدھا کسِ جیوری
آکاسِ پتالا ॥6॥
گُرمتِ نامُ ن ویِسرےَ
سہجے پتِ پائیِۓَ ॥
انّترِ سبدُ نِدھانُ ہےَ
مِلِ آپُ گوائیِۓَ ॥7॥
ندرِ کرے پ٘ربھُ آپݨی
گُݨ انّکِ سماوےَ ॥
نانک میلُ ن چۄُکئی
لاہا سچُ پاوےَ ॥8॥1॥ 17 ॥
ترجمہ
مجھے خدا مل گیا ہے – میں کسی اور کی تلاش نہیں کررہا ہوں۔ گرو نے مجھے سچے رب کی غیب حویلی دکھائی ہے۔اس کی حویلی ابدی اور غیر متزلزل ہے۔ یہ محض مایا کا عکاس نہیں ہے۔سچائی اور قناعت کے ذریعہ ، شک دور کیا جاتا ہے۔ وہ شخص ، جس کے دماغ میں سچا رب رہتا ہے- اس کی صحبت میں ، کوئی گورکھ بن جاتا ہے۔نانکا ، سچ نام آلودگی کو ختم کرتا ہے۔ گوری ، پہلا مہر:وہ جس کا شعور خداوند کے نام سے مشغول ہے- صبح سویرے کی روشنی میں اس کے درشن کی برکت حاصل کریں۔اگر آپ خداوند پر غور نہیں کرتے ہیں تو ، یہ آپ کی اپنی بد قسمتی ہے۔ہر دور میں ، عظیم دینے والا میرا رب خدا ہے۔ گرو کی تعلیمات پر عمل کرتے ہوئے ، کامل عاجز انسان رب کا دھیان کرتے ہیں۔ان کے دلوں میں ، بے ساختہ راگ کمپن ہوتا ہے۔ وہ جو رب کی عبادت کرتے ہیں اور رب سے محبت کرتے ہیں اپنی رحمت کو برباد کرتے ہوئے ، خدا ان کی حفاظت کرتا ہے۔ وہ جن کے دل خداوند ، ہار ، ہار سے معمور ہیں- ان کے درشن کے بابرکت نظارہ کو دیکھ کر ، سکون حاصل ہوتا ہے۔
تمام مخلوقات میں ، ایک ہی رب وسیع ہے۔عقیدت مند ، خودی کے خواہ مخواہ نو جنم لیتے ہیں۔ وہ تنہا سمجھتے ہیں ، جن کو سچ گرو ملا ہے۔اپنی انا کو دبانے کے بعد ، انہیں گرو کے الفاظ کا کلام ملتا ہے۔
نیچے ہونے اور اعلیٰ ہونے کے مابین یونین کے بارے میں کوئی کیسے جان سکتا ہے؟گورکھم نے یہ اتحاد حاصل کیا۔ ان کے ذہنوں میں صلح ہوتی ہے۔ میں بیکار گناہ گار ہوں ، بغیر کسی اہلیت کے۔ مجھ میں کیا میرٹ ہے؟جب خدا اپنی رحمت کا مظاہرہ کرتا ہے ، نوکر نانک آزاد ہوجاتا ہے۔ گواراری گوری کے سولہ اشٹپیڈیز گوری بائراگان ، پہلا مہر:ایک آفاقی خالق خدا۔ سچے گرو کی مہربانی سے:چونکہ دودھ پالنے والا اپنی گائوں پر نگاہ رکھتا ہے اور اس کی حفاظت کرتا ہے ، اسی طرح خداوند رات دن دن ہماری پرواہ اور حفاظت کرتا ہے۔ وہ روح کو سکون عطا کرتا ہے۔ براہ کرم یہاں اور آخرت کی حفاظت فرما ، اے پروردگار ، عاجز رحم کرنے والوں پرمیں تیری حرمت کو تلاش کرتا ہوں۔ برائے مہربانی مجھے اپنی نظروں سے نوازے۔ جہاں بھی میں دیکھتا ہوں ، تم وہاں ہو۔ اے نجات دہندہ ، مجھے بچا۔تم دینے والے ہو ، اور تم مزے دار ہو۔ آپ زندگی کی سانسوں کا سہارا ہیں۔ ماضی کے اعمال کے کرما کے مطابق ، لوگ روحانی حکمت پر غور و فکر کرنے تک اس کی گہرائیوں پر اترتے ہیں یا بلندیوں پر آجاتے ہیں۔خداوند عالم کی حمد کے بغیر اندھیرے دور نہیں ہوتے ہیں۔میں نے دیکھا ہے کہ دنیا لالچ اور گھبرانے سے تباہ ہو رہی ہے۔صرف گورو کی خدمت کرنے سے ہی خدا کو حاصل ہوا ، اور آزادی کا حقیقی دروازہ مل گیا۔لامحدود رب کی موجودگی کا حویلی کسی کے اپنے گھر کے اندر ہے۔ وہ کسی بھی حد سے باہر ہے۔کلمہ الوجود کے بغیر کچھ بھی برداشت نہیں ہوگا۔ افہام و تفہیم کے ذریعہ ، امن حاصل ہوتا ہے۔ جب آپ موت کی کھوج کی لپیٹ میں ہوں گے تو آپ کیا لے کر آئے ہو ، اور آپ کیا لے جائیں گے؟کنویں میں رسی سے جڑی بالٹی کی طرح ، آپ کو آکاشک ایتھرس تک کھینچ لیا جاتا ہے ، اور پھر نیچے انڈرورلڈ کے قریب علاقوں تک جاتا ہے۔ گرو کی تعلیمات پر عمل کریں ، اور خداوند کے نام کو مت بھولنا ، آپ خود بخود عزت حاصل کریں گے۔نفس کے اندر گہرائی سے شاد خزانہ ہے۔ یہ صرف خود غرضی اور غرور کو مٹانے سے حاصل ہوتا ہے۔جب خدا اپنے فضل و کرم سے نوازتا ہے ، تو لوگ کامل خداوند کی گود میں آباد ہوتے ہیں۔نانک ، اس یونین کو توڑا نہیں جاسکتا۔ حقیقی منافع مل جاتا ہے۔
گئُڑی محلا 1॥
گُر پرسادی بۄُجھِ لے
تءُ ہۄءِ نِبیرا ॥
گھرِ گھرِ نامُ نِرنّجنا
سۄ ٹھاکُرُ میرا ॥1॥
بِنُ گُر سبد ن چھۄُٹیِۓَ
دیکھہُ ویِچارا ॥
جے لکھ کرم کماوہی
بِن گُر انّدھِیارا ॥1॥ رہاءُ ॥
انّدھے عقلی باہرے
کِیا تِن سِءُ کہیِۓَ ۔ ॥
بِنُ گُر پنّتھُ ن سۄُجھئی
کِتُ بِدھِ نِربہیِۓَ ۔ ॥2॥
کھۄٹے کءُ کھرا کہےَ
کھرے سار ن جاݨےَ ॥
انّدھے کا ناءُ پارکھۄُ
کلی کال وِڈاݨےَ ॥3॥
سۄُتے کءُ جاگتُ کہےَ
جاگت کءُ سۄُتا ॥
جیِوت کءُ مۄُیا کہےَ
مۄُۓ نہی رۄتا ॥4॥
آوت کءُ جاتا کہےَ
جاتے کءُ آئِیا ॥
پر کی کءُ اپُنی کہےَ
اپُنۄ نہی بھائِیا ॥5॥
میِٹھے کءُ کئُڑا کہےَ
کڑۄُۓ کءُ میِٹھا ॥
راتے کی نِنّدا کرہِ
ایَسا کلِ مہِ ڈیِٹھا ॥6॥
چیری کی سیوا کرہِ
ٹھاکُرُ نہی دیِسےَ ॥
پۄکھرُ نیِرُ وِرۄلیِۓَ
ماکھنُ نہی ریِسےَ ॥7॥
اِسُ پد جۄ ارتھاءِ لےءِ
سۄ گُرۄُ ہمارا ॥
نانک چیِنےَ آپ کءُ
سۄ اپر اپارا ॥8॥
سبھُ آپے آپِ ورتدا
آپے بھرمائِیا ॥
گُر کِرپا تے بۄُجھیِۓَ
سبھُ ب٘رہمُ سمائِیا ॥9॥2॥ 18 ॥
راگُ گئُڑی گُیاریری محلا 3 اسٹپدیِیا
ੴ ستِگُر پ٘رسادِ ॥
من کا سۄُتکُ دۄُجا بھاءُ ॥
بھرمے بھۄُلے آوءُ جاءُ ॥1॥
منمُکھِ سۄُتکُ کبہِ ن جاءِ ॥
جِچرُ سبدِ ن بھیِجےَ
ہرِ کےَ ناءِ ॥1॥ رہاءُ ॥
سبھۄ سۄُتکُ جیتا مۄہُ آکارُ ॥
مرِ مرِ جنّمےَ وارۄ وار ॥2॥
سۄُتکِ اگنِ پئُݨےَ پاݨی ماہِ ॥
سۄُتکُ بھۄجنُ جیتا کِچھُ کھاہِ ॥3॥
سۄُتکِ کرم ن پۄُجا ہۄءِ ॥
نامِ رتے منُ نِرملُ ہۄءِ ॥4॥
ستِگُرُ سیوِۓَ سۄُتکُ جاءِ ॥
مرےَ ن جنمےَ کالُ ن کھاءِ ॥5॥
ساست سِنّم٘رِتِ سۄدھِ دیکھہُ کۄءِ ॥
وِݨُ ناوےَ کۄ مُکتِ ن ہۄءِ ॥6॥
جُگ چارے نامُ اُتمُ سبدُ بیِچارِ ॥
کلِ مہِ گُرمُکھِ اُترسِ پارِ ॥7॥
ساچا مرےَ ن آوےَ جاءِ ॥
نانک گُرمُکھِ رہےَ سماءِ ॥8॥1॥
گئُڑی محلا 3॥
گُرمُکھِ سیوا پ٘ران ادھارا ॥
ہرِ جیءُ راکھہُ ہِردےَ اُر دھارا ॥
گُرمُکھِ سۄبھا ساچُ دُیارا ॥1॥
پنّڈِت ہرِ پڑُ تجہُ وِکارا ॥
گُرمُکھِ بھئُجلُ اُترہُ پارا ॥1॥ رہاءُ ॥
ترجمہ
راگ گوری ، پہلے گرو کے ذریعہ:دنیاوی فریب کاریوں کی وجہ سے آپ کے ذہن میں تنازعہ اسی صورت میں ختم ہوگا جب گرو کے فضل سےہم سمجھتے ہیں،کہ بے عیب خدا جو ہر دل میں بسا ہے میرا مالک ہے۔اس پر غور کریں اور غور کریں کہ گرو کی تعلیمات کے بغیر ، کسی کو بھی دنیاوی کشمکش سے آزاد نہیں کیا جاسکتا۔یہاں تک کہ اگر کوئی لاکھوں رسومات ادا کرے ، گرو کی تعلیمات کے بغیر جہالت کا اندھیرا چلتا رہتا ہے۔ .ہم ان لوگوں سے کیا کہہ سکتے ہیں جو روحانی طور پر اندھے اور حکمت سے عاری ہیں؟گرو کی تعلیمات کے بغیر ، وہ زندگی کا صحیح طریقہ طے نہیں کرسکتے ہیں۔ ایک نیک آدمی ان کے ساتھ کیسے چل سکتا ہے؟روحانی طور پر اندھا شخص دنیاوی دولت کو حقیقی سمجھتا ہے جس کی عدالت میں خدا کی کوئی قیمت نہیں ہے۔ اسے نام کی اصل قیمت کا احساس نہیں ہے۔
کلوگ کا موجودہ دور حیران کن ہے ، روحانی طور پر اندھے شخص کو راستبازی کا اندازہ دینے والا کہا جاتا ہے۔جو شخص دنیاوی کاموں میں شامل ہوتا ہے اسے بیدار کہا جاتا ہے اور جو خدا کی یاد میں جاگتا ہے اسے سویا جاتا ہے۔دنیاوی لوگ روحانی طور پر زندہ شخص کو مردہ سمجھتے ہیں ، لیکن روحانی طور پر مردہ شخص پر غم نہیں کرتے ہیں۔جو شخص گرو کے راستے پر آتا ہے اسے گمشدہ سبب سمجھا جاتا ہے اور جو شخص دنیاوی دولت میں شامل ہوتا ہے ، اس کی آمد کو ثمر آور سمجھا جاتا ہے۔انسان دنیاوی دولت کو پسند کرتا ہے جو دوسروں کے حوالے ہوجائے گا ، لیکن خدا کا نام پسند نہیں کرتے جو واقعی ان کا اپنا ہو۔وہ لوگ ہیں جو میٹھا (خدا کا نام) کو تلخ اور تلخ شیطانی ہوس کو میٹھا کہتے ہیں۔کالیگ میں ، یہ دیکھا جارہا ہے کہ جو خدا کی محبت سے دوچار ہے وہ بہتان کی بات ہے۔لوگ خدا کی نوکرانی (دنیاوی دولت) کی خدمت کرتے ہیں لیکن خدا کی نہیں۔جس طرح تالاب کے پانی کو گھول کر مکھن حاصل نہیں کیا جاسکتا اسی طرح دنیاوی دولت سے بھی امن نہیں مل سکتا۔جو خود کو بھانپنے کی روحانی حیثیت حاصل کرتا ہے وہ میرے طور پر گرو کے طور پر قابل احترام ہے۔’’ نانک ، جو شخص اپنے نفس کا ادراک کرتا ہے ، وہ لاتعداد خدا کا مجسم بن جاتا ہے۔وہ خود ہی ہر طرف پھیل رہا ہے۔ وہ خود لوگوں کو سیدھے راستے سے دور کرتا ہے۔گرو کے فضل سے ، ایک شخص یہ سمجھنے میں آتا ہے کہ خدا ہر جگہ پھیلتا ہے۔تیسرے گرو کے ذریعہ راگ گوری گوارےری: اشٹپادی ایک خالق خدا۔ حقیقی گرو کے فضل سے محسوس ہوا:کسی کے دماغ کی ناپاک ہونے کی وجہ خدا کی بجائے دنیاوی چیزوں سے اس شخص کی محبت ہے۔شکوک و شبہات میں الجھ کر ، شخص پیدائش اور موت کے چکروں میں گھومتا رہتا ہے۔خود غرض منمک کی نجاست کبھی دور نہیں ہوتی ،جب تک کہ اس شخص کا ذہن خدا کے نام کے ساتھ گرو کے لفظ کے ذریعہ نہیں ڈالا جاتا۔دنیاوی چیزوں کے لئے جذباتی وابستگی ذہن کی تمام نجاست کا اڈہ ہے۔ایسا شخص جو مایا سے وابستہ ہے وہ پیدائش اور موت کے چکروں میں چلا جاتا ہے۔آگ ، ہوا اور پانی بھی آلودہ ہیں ، کیونکہ ان میں کیڑے اور بیکٹیریا موجود ہیں۔ (آگ ، پانی اور ہوا وغیرہ سے طہارت کی رسم)جو کھانا کھایا جاتا ہے وہ آلودہ ہوتا ہے۔آلودگی کے تصورات میں پھنسے ہوئے شخص کو کوئی رسوم تقویت نہیں دے سکتا۔یہ صرف خدا کے نام کے ساتھ مبتلا ہونے سے ہی ہےدماغ پاک ہے۔گورو کی تعلیمات پر عمل کرکے ہی ناپاکی کا خاتمہ ہوتا ہے۔-اور پھر کوئی پیدائش اور موت کے چکروں سے نہیں گزرتا۔کوئی ایک مقدس کتابوں پر غور کریں اور تلاش کریں ،خدا کے نام پر پیار اور عقیدت کے ساتھ غور کیے بغیر ، کوئی بھی کبھی بھی آزاد نہیں ہوتا (دماغ کی نجاست یا خلفشار سے)۔چاروں دوروں میں ، نام پر غور کرنے کو بہترین مشورہ سمجھا جاتا تھا۔کالیگ میں بھی صرف گرو کے پیروکار خدا کے نام پر پیار اور احترام کے ساتھ غور و فکر کرکے دنیا کے وسوسوں کے تیرتے ہیں۔صرف خدا ہی ابدی ہے ، پیدائش اور موت کے چکروں سے پاک ہے۔نانک ، گرو کے پیروکار خدا کے نام میں مل جاتے ہیں اور اسی وجہ سے ان کے ذہن میں کوئی برائیاں آلودہ نہیں ہوسکتی ہیں۔تیسرے گرو کے ذریعہ راگ گوری: پنڈت ، گرو کے پیروکار بننے ، گرو کی تعلیمات کو اپنی زندگی کا سہارا بنائیں۔اسے اپنے دل میں قائم رکھے ہوئے ہے۔(اس طرح) ، گرو کے پیروکار بننے سے آپ کو خدا کے دربار میں عزت ملے گی۔اوہ پنڈت ، خدا کی خوبیوں کے بارے میں پڑھیں اور اس پر غور کریں ، اور اپنے گنہگار خیالات کو ختم کردیں۔گورو کی تعلیم پر عمل کرتے ہوئے ، آپ کو خوفناک دنیا کے خوفناک عالم پار سے عبور کریں گے۔
گُرمُکھِ وِچہُ ہئُمےَ جاءِ ॥
گُرمُکھِ میَلُ ن لاگےَ آءِ ॥
گُرمُکھِ نامُ وسےَ منِ آءِ ॥2॥
گُرمُکھِ کرم دھرم سچِ ہۄئی ॥
گُرمُکھِ اہنّکارُ جلاۓ دۄئی ॥
گُرمُکھِ نام رتے سُکھُ ہۄئی ॥3॥
آپݨا منُ پربۄدھہُ بۄُجھہُ سۄئی ॥
لۄک سمجھاوہُ سُݨے ن کۄئی ॥
گُرمُکھِ سمجھہُ سدا سُکھُ ہۄئی ॥4॥
منمُکھِ ڈنّپھُ بہُتُ چتُرائی ॥
جۄ کِچھُ کماوےَ سُ تھاءِ ن پائی ॥
آوےَ جاوےَ ٹھئُر ن کائی ॥5॥
منمُکھ کرم کرے بہُتُ ابھِمانا ॥
بگ جِءُ لاءِ بہےَ نِت دھِیانا ॥
جمِ پکڑِیا تب ہی پچھُتانا ॥6॥
بِنُ ستِگُر سیوے مُکتِ ن ہۄئی ॥
گُر پرسادی مِلےَ ہرِ سۄئی ॥
گُرُ داتا جُگ چارے ہۄئی ॥7॥
گُرمُکھِ زاتِ پتِ نامے وڈِیائی ॥
سائِر کی پُت٘ری بِدارِ گوائی ॥
نانک بِنُ ناوےَ جھۄُٹھی چتُرائی ॥8॥2॥
گئُڑی م: 3 ॥
اِسُ جُگ کا دھرمُ
پڑہُ تُم بھائی ۔ ॥
پۄُرےَ گُرِ سبھ سۄجھی پائی ॥
ایَتھےَ اگےَ ہرِ نامُ سکھائی ॥1॥
رام پڑہُ منِ کرہُ بیِچارُ ॥
گُر پرسادی میَلُ اُتارُ ॥1॥ رہاءُ ॥
وادِ وِرۄدھِ ن پائِیا جاءِ ॥
منُ تنُ پھیِکا دۄُجےَ بھاءِ ॥
گُر کےَ سبدِ سچِ لِو لاءِ ॥2॥
ہئُمےَ میَلا اِہُ سنّسارا ॥
نِت تیِرتھِ ناوےَ ن جاءِ اہنّکارا ॥
بِن گُر بھیٹے جمُ کرے خُیارا ॥3॥
سۄ جنُ ساچا جِ ہئُمےَ مارےَ ॥
گُر کےَ سبدِ پنّچ سنّگھارےَ ॥
آپِ ترےَ سگلے کُل تارےَ ॥4॥
مائِیا مۄہِ نٹِ بازی پائی ॥
منمُکھ انّدھ رہے لپٹائی ॥
گُرمُکھِ الِپت رہے لِو لائی ॥5॥
بہُتے بھیکھ کرےَ بھیکھدھاری ॥
انّترِ تِسنا پھِرےَ اہنّکاری ॥
آپُ ن چیِنےَ بازی ہاری ॥6॥
کاپڑ پہِرِ کرے چتُرائی ॥
مائِیا مۄہِ اتِ بھرمِ بھُلائی ॥
بِنُ گُر سیوے بہُتُ دُکھُ پائی ॥7॥
نامِ رتے سدا بیَراگی ॥
گ٘رِہی انّترِ ساچِ لِو لاگی ॥
نانک ستِگُرُ سیوہِ
سے وڈبھاگی ॥8॥3॥
گئُڑی محلا 3॥
ب٘رہما مۄُلُ وید ابھِیاسا ॥
تِس تے اُپجے دیو مۄہ پِیاسا ॥
ت٘رےَ گُݨ بھرمے ناہی نِج گھرِ واسا ॥1॥
ہم ہرِ راکھے ستِگُرۄُ مِلائِیا ॥
اندِنُ بھگتِ ہرِ نامُ د٘رِڑائِیا ॥1॥ رہاءُ ॥
ت٘رےَ گُݨ باݨی ب٘رہم زنّجالا ॥
پڑِ وادُ وکھاݨہِ سِرِ مارے جمکالا ॥
ترجمہ
گرو کی تعلیمات پر عمل کرنے سے ، انا اپنے اندر سے دور ہوجاتی ہے۔گستاخانہ خیالات کی گندگی گرو کے پیروکار کے ذہن میں نہیں آتی ہے۔خدا کا نام ، کسی گرو کے پیروکار کے ذہن میں رہتا ہے۔
گرو کے پیروکار کے تمام اعمال اور ایمان حق پر مبنی ہیں۔گرو کے پیروکار اپنے ذہن سے انا اور دوائی کو جلا دیتے ہیں۔خدا کی محبت سے رنگین ہونے کے بعد ، ایک گرو کے پیروکار سکون حاصل کرتے ہیں۔اے ’پنڈت ، پہلے خود اپنے دماغ کو بیدار کرو اور خود خدا کے وجود کو سمجھو۔بصورت دیگر ، لوگ آپ کی بات نہیں سنیں گے ، یہاں تک کہ جب آپ ان کی تبلیغ کرنے کی کوشش کریں گے۔گرو کی تعلیمات پر عمل کرتے ہوئے ، زندگی کے صحیح طریقے کو سمجھیں ، آپ ہمیشہ خوشی میں رہیں گے۔
خود غرض حد سے زیادہ ہوشیار ہے اور ایک جھوٹا مظاہرہ کرتا ہے ،جو کچھ بھی وہ کرتا ہے خدا کے دربار میں قابل قبول نہیں ہے۔لہذا وہ پیدائش اور موت کے چکروں میں قائم ہے اور اسے کہیں بھی روحانی سکون نہیں ملتا ہے۔انا سینٹرک بڑے فخر سے مذہبی رسومات انجام دیتا ہے۔وہ مراقبہ میں بیٹھے رہنے کا ڈرامہ کرتا ہے ، لیکن دراصل ڈساک کی طرح اس کا دماغ اگلے شکار پر طاری ہوتا ہے۔وہ توبہ کرے گا ، جب موت کے آسیب کی گرفت میں آجائے گا۔گرو کے مشورے پر عمل کیے بغیر ، آزادی حاصل نہیں کی جاسکتی ہے۔صرف گرو کی مہربانی سے ہی ، خدا کو پہچان سکتا ہے۔
یہ گرو کے فضل سے ہی خدا سے ملتا ہے۔ نہ صرف اس دور میں ، بلکہ چاروں عہدوں میں ، صرف گرو ہی نجات کا ذریعہ رہے ہیں۔گرو کے پیروکار کے لئے ، خدا کا نام اس کا اعزاز ، معاشرتی مقام اور شان ہے۔نام کے ذریعہ ، گرو کے پیروکار دنیاوی لگاؤوں کو مٹا دیتے ہیں۔اے ’نانک ، نام کے بغیر ساری چالاکی باطل ہے۔راگ گوری ، تیسرا گرو:اے ’میرے بھائیو ، آج کے دن اور عمر کے راستباز زندگی کے بارے میں مقدس کتابوں میں کیا لکھا ہے اس کو پڑھیں اور اس پر غور کریں۔
کامل گرو نے یہ واضح تفہیم عطا کیا ہے ،یہاں اور آخرت دونوں ، یہ خدا کا نام ہے جو ہمارا واحد ساتھی ہوگا۔اے میرے دوستو ، خدا کے بارے میں پڑھیں اور اپنے دماغ میں اس پر غور کریں ،
اور گرو کے فضل کے ذریعہ اپنے دُشمنوں کی غلاظت کو ختم کرو۔کسی مذہبی جھگڑے میں گھس کر خدا کا احساس نہیں ہوتا ہے۔دلیت کی محبت سے ، جسم اور دماغ روحانی طور پر غیر مطمئن رہتے ہیں۔
یہ صرف گورو کے کلام سے ہی ابدی خدا کی رضا حاصل کرسکتا ہے۔یہ دنیا غرور کے ساتھ آلودہ ہے۔یاتری کے مقدس مقامات پر روزانہ صفائی غسل کرنے سے ، غرور ختم نہیں ہوتا ہے۔گرو سے ملاقات کیے بغیر ، وہ موت کے خوف سے عذاب میں مبتلا ہیں۔صرف وہی شخص سچا ہے ، (خدا کا مجسم) جس نے اپنی انا کو فتح کرلیا۔گرو کے کلام کے ذریعہ ، وہ ہوس ، لالچ ، غصہ ، انا اور جذباتی لگاؤ کے پانچوں جذبات کو فتح کرتا ہے۔ہ اپنے آپ کو بچاتا ہے ، اور اپنے پورے نسب کو بھی بچاتا ہے۔
(خدا) ، ایک جادوگر کی طرح ، مایا سے جذباتی لگاؤ کا ڈرامہ چلا گیا ،اور خود غرضی ، مایا سے اندھے ہوکر ، اس ڈرامے میں الجھے ہوئے ہیں۔لیکن گرو کے پیروکار خدا کی محبت سے وابستہ رہ کر اس ڈرامے سے الگ ہی رہتے ہیں۔یہ چھپانے والا ، جو صداقت کو صرف بیرونی مذہبی لباس سمجھتا ہے مختلف مذہبی بھیس۔لیکن اپنے اندر ، وہ دنیاوی دولت کی خواہش اٹھاتا ہے اور انا میں بھٹکتا رہتا ہے۔وہ خود پر غور نہیں کرتا ، اور اسی وجہ سے زندگی کا کھیل کھو دیتا ہے۔مذہبی لباس پہننے کے بعد ، وہ بہت چالاک ہے۔لیکن حقیقت میں مایا سے پیار کی وجہ سے وہ انتہائی شکوک و شبہات میں بالکل کھو گیا ہے۔گرو کے مشورے پر عمل کیے بغیر ، اسے بے حد تکلیف ہوتی ہے۔وہ ، جو خدا کی محبت سے رنگین رہتے ہیں ، ہمیشہ دنیوی امور سے الگ ہوجاتے ہیں۔یہاں تک کہ اپنے اہل خانہ کی دیکھ بھال کرتے ہوئے بھی ، وہ خدا سے ملحق رہتے ہیں۔اے نانک ، جو سچے گرو کی تعلیمات پر عمل کرتے ہیں وہ بہت خوش قسمت ہیں۔تیسرے گرو کے ذریعہ راگ گوری:بہما کو ویدوں کے مطالعہ کا بانی سمجھا جاتا ہے۔یہ بھی مانا جاتا ہے کہ اس نے دوسرے تمام معبودوں کو پیدا کیا ہے ، لیکن وہ سب دنیاوی لگاؤ اور خواہش کے لالچ میں پائے جاتے ہیں۔یہ دیوتا مایا کے تین طریقوں (نائب ، خوبی اور طاقت) میں بھٹکتے رہتے ہیں ، اور خدا کے دربار میں ان کو جگہ نہیں ملی۔خدا نے مجھے سچے گرو سے جوڑ کر مایا سے بچایا ہے ،جس نے مجھے ہمیشہ محبت اور عقیدت کے ساتھ خدا کی یاد کے بارے میں ہدایت دی ہے۔برہما کی خوشخبری لوگوں کو مایا کے تینوں تسلسل میں الجھا رہی ہے۔اس انجیل کو پڑھنے کے بعد ، علماء تنازعات میں پڑ جاتے ہیں اور موت کے خوف سے اذیت دیتے ہیں۔